Home » کھیل » دبئی ٹیسٹ پر پاکستان کی گرفت مضبوط، جیت کیلئے 7 وکٹیں درکار

دبئی ٹیسٹ پر پاکستان کی گرفت مضبوط، جیت کیلئے 7 وکٹیں درکار

پاکستان نے ٹیسٹ سیریز کے پہلے میچ کے چوتھے روز دوسری اننگز 181 رنز پر ڈیکلیئر کرکے آسٹریلیا کو جیت کے لیے 462 رنز کا ہدف دے دیا، جس کے تعاقب میں 3 آسٹریلوی بلے باز آؤٹ ہوگئے۔

چوتھے روز کا کھیل ختم ہوا تو آسٹریلیا کے 136 رنز تھے اور اسے جیت کے لیے کل آخری روز مزید 326 رنز درکار ہیں۔

دبئی میں کھیلے جارہے ٹیسٹ کے چوتھے روز دن کا آغاز ہوا تو پاکستان کا اسکور 3 وکٹوں پر 45 رنز تھا تاہم امام الحق اور حارث سہیل نے اسکور کو مزید آگے بڑھایا اور دوسری اننگز میں ٹیم کی سنچری مکمل کرادی۔

امام الحق اور حارث سہیل 110 کے اسکور پر آؤٹ ہوئے اور دونوں بلےبازوں نے بالترتیب 48 اور 39 رنز بنائے۔

اسد شفیق اور بابر اعظم نے پاکستان کی برتری مزید بہتر بناتے ہوئے اسکور کو 181 رنز تک پہنچایا تاہم اسد شفیق 41 رنز بنا کر لایون کی گیند پر آؤٹ ہوئے جس کے بعد پاکستان نے دوسری اننگز ڈیکلیئر کرنے کا فیصلہ کیا۔

پاکستان نے 461 رنز کی برتری حاصل کرنے کے بعد آسٹریلیا کو ایک مشکل ہدف دیا۔

بابراعظم نے آؤٹ ہوئے بغیر 28 رنز بنائے جبکہ آسٹریلیا کی جانب سے ہولینڈ نے 3 اور ناتھن لایون نے 2 وکٹیں حاصل کیں۔

عثمان خواجہ اور ارون فنچ نے دوسری اننگز میں بھی ذمہ دارانہ بلے بازی کا مظاہرہ کرتے ہوئے بہتر آغاز کیا۔

تاہم 87 رنز کے مجموعی اسکور پر ارون فنچ، محمد عباس کا شکار بن گئے اور اس کے بعد لگاتار دو مزید وکٹیں 87رنز پر ہی گرگئیں، ان دونوں کھلاڑیوں کو محمد عباس نے ہی پوہلین بھیجا، شان مارش اور مچل مارش بغیر کوئی رن بنائے آؤٹ ہوئے۔

جس کے بعد چوتھے دن کا کھیل ختم ہونے تک اوپنر عثمان خواجہ اور ٹریوس ہیڈ نے بالترتیب 50 اور 37 رنز کی ذمہ دارانہ اننگز کھیلتے ہوئے اسکور کو 136 رنز تک پہنچادیا۔

خیال رہے کہ پہلی اننگز میں آسٹریلیا کی پوری ٹیم عثمان خواجہ اور ارون فنچ کی 142 رنز کی بہترین اوپننگ شراکت کے باوجود 202 رنز پر آؤٹ ہوگئی تھی۔

پاکستان کی جانب سے اپنا پہلا ٹیسٹ کھیلنے والے بلال آصف نے تباہ کن باؤلنگ کرتے ہوئے 6 وکٹیں حاصل کی تھیں اور محمد عباس نے 4 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا تھا۔

About Admin

Google Analytics Alternative