Home » 2018 » July » 10

Daily Archives: July 10, 2018

سپریم کورٹ کے حکم پر آصف زرداری اور فریال تالپور کے نام ای سی ایل میں شامل

اسلام آباد: سپریم کورٹ کے حکم پر وزارت داخلہ نے سابق صدر آصف علی زرداری اور ان کی بہن فریال تالپور سمیت 35 افراد کے نام ای سی ایل میں شامل کردیے۔

سپریم کورٹ میں جعلی بینک اکاؤنٹس کے ذریعے رقوم کی منتقلی ازخود نوٹس کیس کی سماعت ہوئی۔ عدالت نے تحریری حکم نامہ جاری کرتے ہوئے جعلی بینک اکاؤنٹس سے فوائد حاصل کرنے کے الزام میں سابق صدر آصف زرداری اور ان کی بہن فریال تالپور سمیت 35 افراد کے نام ای سی ایل میں ڈالنے کا حکم دیتے ہوئے تمام افراد کو 12 جولائی کو سپریم کورٹ میں طلب کرلیا ہے۔

سپریم کورٹ کے حکم پر عمل درآمد کرتے ہوئے وزارت داخلہ نے ان تمام افراد کے نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ میں شامل کرلیے ہیں۔  عدالت نے چیئرمین نیب، چیئرمین ایف بی آر اور ایس ای سی پی کو بھی نوٹسز جاری کیے جب کہ تمام افراد کی حاضری کو یقینی بنانے کے لیے آئی جی سندھ کو بھی ہدایات جاری کردی گئی ہیں۔

تحریری حکم نامے کے مطابق جن دیگر افراد نے بینک اکاؤنٹس سے فوائد حاصل کیے ان میں طارق سلطان، ارم عقیل، محمد اشرف، اقبال آرائیں، محمد عمیر، عدنان جاوید، قاسم علی، انورمجید، عبدالغنی مجید، اسلم مسعود، عارف خان، نورین سلطان، کرن امان، نصیر عبداللہ لوتھہ، محمد اقبال خان نوری اور اعظم وزیر خان شامل ہیں۔

حکم نامے کے مطابق جن کمپنیوں نے جعلی اکاؤنٹس میں رقوم جمع کرا رکھی تھیں ان میں انصاری شوگر مل، اومنی پولیمر پیکجز، پاک ایتھانول، چیمبڑ شوگر مل، ایگروفارم، پارتھینان، اے ون انٹرنیشنل، لکی انٹرنیشنل، لاجسٹک ٹریڈنگ، رائل انٹرنیشنل  اور عمیر ایسوسی ایٹس شامل ہیں۔

پاک فوج کا 2 دن کی تنخواہ دیامربھاشا اور مہمند ڈیم کیلئے دینے کا اعلان

پاک فوج نے دیامر بھاشا ڈیم اور مہمند ڈیم کی تعمیر کے لیے 2 دن کی تنخواہیں دینے کا اعلان کیا ہے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل آصف غفور نے ٹوئیٹر پر بتایا کہ دیامربھاشا اورمہمند ڈیم کے لیے فوج کے افسران دو دن کی تنخواہ دیں گے۔

ان کہنا تھا کہ قومی فریضے کے لیے پاک فوج، بحریہ اور فضائیہ کے افسران دو دن کی تنخواہ دیں گے جبکہ سپاہی ایک دن کی تنخواہ ادا کریں گے۔

۔

میجر جنرل آصف غفور نے ٹوئیٹ کے آخر میں ہیش ٹیگ کے ساتھ ’ڈیمز پاکستان کے لیے‘ بھی استعمال کیا۔

واضح رہے کہ گزشتہ ہفتے سپریم کورٹ نے مختصر فیصلہ سناتے ہوئے مشترکہ مفادات کونسل کے متفقہ فیصلوں کی روشنی میں مؤثر اقدامات کرنے کی ہدایت دی تھی، جس کے تحت 4 ہزار 5 سو میگاواٹ کی گنجائش والے دیامر بھاشا ڈیم جبکہ 700 میگا واٹ والے مہمند ڈیم کی تعمیر کے احکامات دیے گئے تھے۔

اس کے بعد وزارت خزانہ کی جانب سے ملک میں ڈیمز کی تعمیر کے سلسلے میں ’دیامیر بھاشا ڈیم اور مہمند ڈیم فنڈ-2018‘ کے عنوان سے فنڈز اکھٹے کرنے کے لیے بینک اکاؤنٹ کھولا گیا تھا۔

یہ اکاؤنٹ سپریم کورٹ کی جانب سے وفاقی حکومت، واپڈا اور دیگر اعلیٰ حکام کو دیے گئے خصوصی احکامات کی تعمیل کرتے ہوئے کھولا گیا تھا۔

سب سے پہلے چیف جسٹس آف پاکستان میاں ثاقب نثار نے ڈیمز کی تعمیر کے لیے اپنے ذاتی اکاؤنٹ سے 10 لاکھ روپے فنڈز کی مد میں اس اکاؤنٹ میں جمع کرائے تھے۔

سندھ کے لوگوں کو آصف زرداری کو شکست دینے کا موقع مل رہا ہے، عمران خان

شہداد کوٹ: پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کا کہنا ہے کہ 25 جولائی کو سندھ کے لوگوں کو آصف زرداری کو شکست دینے کا موقع مل رہا ہے۔

شہداد کوٹ میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ آج بلوچستان سے زیادہ خراب حالات اندرون سندھ کے ہیں، کئی برس سے اندرون سندھ کا حال دیکھتا آیا ہوں، افسوس ہوا یہاں کوئی بڑا اسپتال نہیں، سندھ میں ہزاروں لوگ ہیپاٹائٹس کا شکار ہیں، یہاں پانی نہیں، بجلی  کبھی کبھی آتی ہے۔

آصف زرداری اورفریال تالپورکا نام ای سی ایل میں شامل ہونے پر عمران خان کا کہنا تھا کہ35  ارب روپے کی منی لانڈرنگ کے باعث ان کا نام ای سی ایل میں ڈالا گیا ، جو سندھ میں لوٹ مار ہورہی ہے وہ کسی صوبے میں نہیں ہورہی، جتنا پیسہ سندھ سے چوری ہوا ایسا پاکستان کی تاریخ میں کبھی نہیں ہوا۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ سوشل میڈیا پرفریال تالپور لوگوں کو ووٹ دینے کے حوالے سے دھمکیاں دے رہی ہیں، یہ عوام کے خوف پر حکومت کرتے ہیں، یہ سندھ کے لوگوں کو انسان نہیں سمجھتے لیکن 25 جولائی کو سندھ کے لوگوں کو آصف زرداری کو شکست دینے کا موقع مل رہا ہے اور یہ موقع بار بار نہیں ملتا، آپ کو ان ظالموں کے خلاف کھڑا ہونا چاہیے، اپنی تقدیر بدلنے کے لیے ان کے خلاف ووٹ ڈالیں۔

پاکستان نے مقامی وسائل سے تیار2 سیٹلائٹس خلا میں بھیج دیئے، دفترخارجہ

اسلام آباد: پاکستان نے سیٹلائٹ کے میدان میں ایک اہم سنگ میل عبور کرتے ہوئے دو سیٹلائٹس خلاء میں بھیج دیں۔

ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا کہ پاکستان ریموٹ سینسنگ سیٹلائٹ (پی آر ایس ایس) ون اور پاکستان ٹیکنالوجی ایوالیوشن سیٹلائٹ (پاک ٹیس ون اے) نامی سیٹلائٹ خلاء میں بھیج دیے ہیں۔

ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق دونوں سیٹلائٹس میں جی پی ایس اور جی آئی ایس کی سہولیات بھی دستیاب ہیں جبکہ دونوں سیٹلائٹس پاکستان میں تیار کیے گئے ہیں لیکن انہیں چین کے جیوکوان سیٹلائٹ سینٹر سے لانچ کیا گیا۔

پی آر ایس ایس ون نامی سیٹلائٹ کا وزن 1200 کلو گرام ہے اور یہ 640 کلو میٹر کی اونچائی پر کام کرے گا۔

ان سیٹلائٹس سے پاکستان کو زمین کی نقشہ سازی، زراعت کی درجہ بندی اور تشخیص، شہری اور دیہی منصوبہ بندی، ماحولیاتی نگرانی، قدرتی آفت کے انتظام، ملک کی سماجی-اقتصادی ترقی کے لیے پانی وسائل کے انتظام سے متعلق معلومات کے حصول میں مدد ملے گی۔

ترجمان کے مطابق دوسری سیٹلائٹ پاک ٹیس ون اے بھی سپارکو کے انجینئرز کی جانب سے تیار کیا گیا اور اس کا وزن 285 کلو گرام ہے اور یہ 610 کلو میٹر اونچائی پر کام کرے گا۔

ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق دونوں سیٹلائٹ کی کامیابی سے پاکستان اور چین کے درمیان تعلقات مزید مستحکم ہوں گے۔

دوسری جانب صدر مملکت ممنون حسین اور نگراں وزیر اعظم جسٹس (ر) ناصر الملک کی جانب سے اس تاریخی کامیابی پر سپارکو کے سائنسدانوں، انجینئرز کو مبارک بات دی۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے سائنسدان اور انجینئرز ملک کے لیے فخر کا باعث ہیں۔

اس موقع پر وزیر اعظم کی جانب سے قوم اور سپارکو کو اس بات کی یقین دہانی کرائی گئی کہ اسپیس ٹیکنالوجی میں مزید جدت کے لیے ان کی مکمل حمایت جاری رہے گی۔

نیب نے آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں پرویز مشرف کے اہلخانہ کو طلب کرلیا

 اسلام آباد: قومی احتساب بیورو (نیب) نے آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں سابق صدر و آرمی چیف پرویز مشرف کی اہلیہ، بچوں اور داماد کو طلب کرلیا۔

نیب نے آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے الزام میں پرویز مشرف کے خلاف تحقیقات کا دائرہ وسیع کردیا ہے۔ نیب راولپنڈی نے سابق صدر کی اہلیہ صہبا، بیٹے بلال، بیٹی عائلہ اور داماد عاصم کو 11 جولائی کو پیش ہونے کی ہدایت کی ہے۔ نیب نے بیگم صہبا مشرف کو ایک گھر، تین پلاٹ اور 6 گاڑیوں کی تفصیلات پیش کرنے کی ہدایت کی ہے۔

سابق صدر پرویز مشرف کے خلاف آمدن سے زائد اثاثے، بدعنوانی اور اختیارات کے ناجائز استعمال کا کیس ہے۔ مئی میں کیس کی تحقیقات کے دوران نیب نے پرویز مشرف اور ان کے اہل خانہ کی گاڑیوں کی تفصیلات بھی حاصل کی تھیں۔

احتساب عدالت نے کیپٹن (ر) صفدرکو اڈیالہ جیل بھجوادیا

 اسلام آباد: قومی احتساب بیورو(نیب) نے سابق وزیراعظم نواز شریف کے داماد اورمسلم لیگ (ن) کے رہنما کیپٹن (ر) صفدر کو اڈیالہ جیل بھجوادیا۔

کیپٹن (ر) صفدرکوبکتربند گاڑی میں احتساب عدالت کے عقبی راستے سے لایا گیا، نیب راولپنڈی کی ٹیم نے کیپٹن ریٹائرڈ صفدرکو سخت سکیورٹی میں جج محمد بشیر کے روبرو پیش کیا، جنہوں نے مجرم کو اڈیالہ جیل بھیجنے کے احکامات دئیے جس کے بعد انہیں اڈیالہ جیل بھجوادیا گیا۔

اس سے قبل گزشتہ روزکیپٹن ریٹائرڈ صفدر نیب کوگرفتاری دینے راولپنڈی پہنچے، تو(ن) لیگ کے کارکنوں نے ان کا بھرپور استقبال کیا، کیپٹن ریٹائرڈ صفدر ریلی کی قیادت کرتے راولپنڈی کے مختلف علاقوں میں گئے، اس دوران پولیس نے انہیں گرفتار کرنے کی کوشش کی مگرکامیابی نہ ملی۔

کیپٹن ریٹائرڈ صفدرنے پہلے لیاقت باغ اور پھرسکستھ روڈ پرگرفتاری دینے کا اعلان کیا، وہ پلان کے مطابق راجہ بازار، صرافہ بازارسے ہوتے سکستھ روڈ تک جانا چاہتے تھے، مگر نیب نے انہیں صرافہ بازارسے ہی گرفتارکرلیا تاہم ان کی باضابطہ گرفتاری سکستھ روڈ پر مسلم لیگ (ن) کے مرکزی دفترمیں عمل میں لائی گئی۔

واضح رہے کہ احتساب عدالت نے ایون فیلڈ ریفرنس میں نوازشریف کو 10 سال، مریم نواز کو 7 اور کیپٹن (ر) صفدر کو ایک سال قید کی سزا سنائی ہے۔

شیڈول بینکوں کی سرمایہ کاری 83 فیصد گھٹ گئی

اسلام آباد: گزشتہ مالی سال 2017-18 کے دوران شیڈول بینکوں کی جانب سے کی جانے والی سرمایہ کاری میں83  فیصد کمی واقع ہوئی ہے۔

اسٹیٹ بینک آف پاکستان (ایس بی پی) کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ مالی سال کے دوران شیڈولڈ بینکوں کی جانب سے صرف 190 ارب روپے کی سرمایہ کاری کی گئی ہے جبکہ مالی سال 2016-17 کے دوران بینکوں نے1099  ارب روپے کی سرمایہ کاری کی تھی۔

اس طرح مالی سال 2016-17 کے مقابلے میں گزشتہ مالی سال 2017-18 کے دوران بینکوں کی جانب کی جانے والی سرمایہ کاری میں909 ارب روپے یعنی83 فیصد کی کمی ریکارڈ کی گئی ہے۔

ایس بی پی کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ مالی سال کے اختتام تک شیڈولڈ بینکوں کی جانب سے کی جانے والی سرمایہ کاری 8.178 کھرب روپے ریکارڈ کی گئی ہے۔

 

ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ مصنوعی دل لگانے کا کامیاب آپریشن

کراچی: پاکستان میں پہلی مرتبہ مریضہ کو مصنوعی دل (مکینکل ہارٹ) لگانے کا آپریشن کامیابی کے ساتھ مکمل ہوگیا ہے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق ملکی تاریخ میں شعبہ طب نے اہم سنگِ میل عبور کرلیا ہے اور پاکستان میں پہلی مرتبہ ایک مریضہ کو مصنوعی دل (مکینکل ہارٹ) لگانے کے لئے کیا گیا آپریشن کامیاب ہوگیا ہے۔  کراچی میں واقع قومی ادارہ برائے امراضِ قلب میں 62 سالہ خاتون نفیسہ میمن کو مکینکل ہارٹ لگایا گیا۔

ڈاکٹرپرویز چوہدری نے ہارٹ ٹرانسپلانٹسیشن کرنے والی ڈاکٹرز کی ٹیم کی سربراہی کی جب کہ حساس نوعیت کے اس آپریشن میں حصہ لینے والی ماہرین کی ٹیم میں امریکی ڈاکٹرز بھی شامل تھے۔ آپریشن کی کامیابی کے بعد ڈاکٹرپرویز چوہدری کا کہنا تھا کہ کراچی کی 62 سالہ نفیسہ میمن کو مکینکل ہارٹ لگایا گیا، مریضہ کا دل صرف 15 فیصد کام کررہا تھا، آپریشن تقریباً ساڑھے 3 گھنٹے جاری رہا جو کامیاب رہا، ہارٹ ٹرانسپلانٹیشن کے بعد مریضہ کی حالت خطرے سے باہر ہے۔

واضح رہے کہ مصنوعی دل ایسے مریضوں کو لگایا جاتا ہے جن کا دل ناکارہ یا کمزور ہوجائے اور اس آپریشن میں تقریباً 5 گھنٹے دکارہوتے ہیں، مکینکل ہارٹ لگنے کے بعد مریض ایک نارمل زندگی گزارنے کے قابل ہوجاتا ہے۔

 

Google Analytics Alternative