Home » 2018 » August » 07

Daily Archives: August 7, 2018

پی ٹی آئی پارلیمانی پارٹی نے عمران خان کو وزیراعظم نامزد کردیا

اسلام آ باد: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی پارلیمانی پارٹی نے عمران خان کو وزیراعظم نامزد کردیا۔

پی ٹی آئی کے ارکان اسمبلی نے باضابطہ طور پر عمران خان کو وزارت عظمیٰ کا امیدوار نامزد کردیا ہے۔ اسلام آباد میں چیرمین عمران خان کی زیر صدارت پی ٹی آئی کی پارلیمانی پارٹی کا اجلاس ہوا۔ پی ٹی آئی کے وائس چیرمین شاہ محمود قریشی نے عمران خان کو پارلیمانی لیڈر نامزد کرنے کی تحریک پیش کی جسے اتفاق رائے سے منظور کرلیا گیا۔

اس موقع پر تمام اراکین نے کھڑے ہو کر چیئرمین تحریک انصاف کو مبارکباد پیش کی اور ہال دیر تک تالیوں سے گونجتا رہا۔ توقع تھی کہ آج کے اجلاس میں ہی قومی اسمبلی کے اسپیکر اور ڈپٹی اسپیکر کے لئے بھی نامزدگیاں کی جائیں گی تاہم ایسا نہیں ہوا۔

اجلاس کے بعد میڈیا بریفنگ میں شاہ محمود قریشی نے کہا کہ عمران خان نے نومنتخب ارکان کو مبارکباد دی، پی ٹی آئی میں شامل ہونے والے آزاد ارکان کا پارلیمانی پارٹی میں خیرمقدم کیا گیا، اتنی عددی اکثریت حاصل ہوگئی ہے کہ مرکز میں حکومت بناسکیں، عمران خان نے ارکان اسمبلی کو آئندہ چیلنجز پر اعتماد میں لیا اور قوم کی توقعات سے آگاہ کیا۔

اپوزیشن کا اتحاد غیر فطری و عارضی ہے

شاہ محمود قریشی نے مضبوط اپوزیشن کا تاثر مسترد کرتے ہوئے کہا کہ مختلف الخیال سیاسی جماعتیں اکٹھی ہوگئی ہیں جن کے نظریے اور سوچ میں کوئی مطابقت نہیں، یہ غیر فطری اور عارضی اتحاد ہے جو دیرپا نہیں رہے گا، انہیں تحریک انصاف کا خوف یکجا کررہا ہے، پیپلزپارٹی اور ن لیگ کل ایک دوسرے سے دست و گریباں تھیں لیکن آج بغلگیر ہیں، پیپلزپارٹی اور ایم ایم اے میں کیا نظریاتی ہم آہنگی ہے؟، عمران خان کی نظر میں یہ کمزور ترین اپوزیشن ہے۔

اسپیکرو ڈپٹی اسپیکرکی نامزدگی ایجنڈے میں شامل نہیں تھی

شاہ محمود قریشی نے بتایا کہ آج اجلاس میں اسپیکر اور ڈپٹی اسپیکر کی نامزدگی کا ایجنڈا شامل نہیں تھا اس لیے عہدوں پر کوئی بات نہیں ہوئی، جب کوئی فیصلہ ہوگا تحریک انصاف کا میڈیا سیل باقاعدہ اطلاع دے گا، عمران خان کپتان ہیں جس کو جو عہدہ دیا جائے گا سب خوشی سے قبول کریں گے۔

پی ٹی آئی ارکان اسمبلی کی تعداد 138 ہوگئی ہے

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ آج اجلاس میں پارٹی کے سینئر رہنما، قومی اسمبلی اور سینیٹ کے ارکان کو مدعو کیا گیا، تقریبا 225 افراد نے اجلاس میں شرکت کی جن میں سے 170 قومی اسمبلی اور سینیٹ کے ارکان ہیں۔ فواد چوہدری نے بتایا کہ پی ٹی آئی کے ارکان قومی اسمبلی کی کل تعداد 138 ہے جن میں سے 100 آج موجود تھے جن میں نئے شامل آزاد ارکان بھی شامل ہیں۔

ایاز صادق نے اسپیکر ہاؤس کو اپوزیشن کا اکھاڑہ بنادیا

شاہ محمود قریشی نے قومی اسمبلی کے موجودہ اسپیکر ایاز صادق کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ اسپیکر غیر جانبدار ہوتا ہے، لیکن ایاز صادق نے اسپیکر ہاؤس کو اپوزیشن کا اکھاڑہ بنادیا ہے جہاں اپوزیشن کے اجلاس منعقد ہورہے ہیں اور منصوبہ بندی کی جارہی ہے، یہ پارلیمانی آداب و روایات کے برعکس ہے، اپوزیشن کے پاس بہت سی جگہیں ہیں، اسپیکر ہاؤس کو اپوزیشن کا اکھاڑہ نہ بنایا جائے۔

واضح رہے کہ پی ٹی آئی کے مطابق اسے وزارت عظمیٰ کے لیے 174 ارکان اسمبلی کی حمایت حاصل ہوچکی ہے، جب کہ مزید ارکان کی شمولیت کا سلسلہ بھی جاری ہے۔

 

منی لانڈرنگ کیس میں بھی نواز شریف والی جے آئی ٹی بنا دیتے ہیں، چیف جسٹس

اسلام آباد: چیف جسٹس پاکستان میاں ثاقب نثار نے کہا ہے کہ چوری کا پیسہ ہضم نہیں کرنے دیں گے۔

سپریم کورٹ میں جعلی بنک اکاؤنٹس سے منی لانڈرنگ اسکینڈل کی سماعت ہوئی۔ ڈی جی ایف آئی اے بشیر میمن نے بتایا کہ 29 مشکوک اکاؤنٹس ہیں جو سمٹ بنک ،سندھ بنک اور یونائیٹڈ بنک میں کھولے گئے، ان کے ذریعے مشکوک ٹرانزیکشنز ہوئیں، اومنی گروپ نے 2082 ملین روپے جعلی بنک اکاؤنٹس میں جمع کرائے اور مشکوک بنک اکاؤنٹس سے رقم زرداری گروپ کو بھی منتقل ہوئیں، جعلی اکاؤنٹس میں 35 ارب کی ٹرانزیکشنز ہوئیں۔ ایف آئی اے نے سپریم کورٹ سے جے آئی ٹی بنانے کی استدعا کی۔

چیف جسٹس نے کہا کہ  نواز شریف والی جے آئی ٹی بنا دیتے ہیں، وہی جے آئی ٹی بنے گی تو بیلنس ہو جائے گا، جعلی اکاؤنٹس کھول کر کالا دھن جمع کرایا گیا، آصف علی زرداری کے وکیل کہتے ہیں تحقیقات ہی نہ کریں، لوگ کہتے ہیں چیف جسٹس کو معلوم نہیں کس پر ہاتھ ڈال دیا ہے، چیف کو لگ پتا جائے گا، آپ لوگ چاہتے ہیں کہ ہم دھمکیاں دینے والوں سے نہ لڑیں، مجھے زندگی موت کی کوئی پروا نہیں، چیف ہاتھ ڈال رہا ہے تو کسی سے ڈرتا نہیں، دیکھنا یہ ہے کہ کالا دھن کو سفید کرنے کا بینفیشری کون ہے، چوری کا پیسہ ہضم نہیں کرنے دیں گے، آئندہ سماعت پر جے آئی ٹی بنانے کا فیصلہ کریں گے۔

 آصف زرداری اور فریال تالپور کے وکیل فاروق ایچ نائیک نے عدالت سے درخواست کی کہ اس مقدمہ میں بہت سے لوگ بدنام کیے جا رہے ہیں، عدالت مقدمہ کی پبلسٹی روکے، منی لانڈرنگ کا مقدمہ حسین لوائی اور سمٹ بنک کیخلاف ہے، ایف آئی آر میں آ صف زرداری نامزد نہیں۔ چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ جن پر الزام ہے وہ شامل تفتیش ہوکر خود کو کلیئر کریں۔

مرکزی ملزم انور مجید کے وکیل نے کہا کہ انور مجید بیمار اور دبئی کے ہسپتال میں داخل ہیں، اس لیے پیش نہیں ہوسکتے، انور مجید کے بچے بھی بیرون ملک ہیں۔ چیف جسٹس نے کہا کہ سب باہر ہیں تو وکالت نامے پر دستخط کس نے کیے، بڑے آدمیوں کیلئے قانون مختلف نہیں ہوسکتا، انور مجید اور دیگر لوگوں کے بیان ریکارڈ کرنا چاہتے ہیں، اگر کوئی بیمار ہے تو اسٹریچر پر آجائیں۔

ڈی جی ایف آئی اے نے کہا کہ کیس کے گواہوں کو ہراساں کیا جا رہا ہے، تمام اکاوٴنٹ ہولڈر غریب لوگ ہیں، اچھے کارپوریٹ وکیل کی بھی ضرورت ہے، یہ اسکینڈل 35ارب سے کہیں زیادہ کا ہے، ہمیں مزید جعلی اکاؤنٹس اور ٹرانزیکشن مل سکتی ہیں۔

طارق سلطان نے پیش ہوکر بتایا کہ میرے نام سے جعلی اکاؤنٹ کھولا گیا۔ چیف جسٹس نے کہا کہ اتنا بڑا فراڈ ہوا ہے، کرپشن کے معاملات پر عدالت عظمی کے اختیار پر کوئی قدغن نہیں، مشترکہ تحقیقاتی ٹیم تشکیل دے دیتے ہیں، دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہو جائے گا، ہمارا اختیار ہے کہ کرپشن کو پکڑیں، یہ قوم کا پیسہ ہے۔

سپریم کورٹ میں جعلی اکاؤنٹ ہولڈر خاتون نے پیش ہوکر بتایا کہ انہیں کراچی کے تھانہ گلستان جوہر سے کال آئی اور ہراساں کیا گیا،  میرے گھر پولیس آکر رات 12 بجے تک بیٹھی رہی، نوکری کے پانچ روز بعد مجھ سے سادہ اکاؤنٹس اوپننگ فارم پر دستخط کرائے گئے۔ چیف جسٹس نے کہا کہ مجھے معلوم ہے پولیس کس نے بھجوائی، سندھ حکومت نے کچھ ایسا ویسا کیا تو چھوڑیں گئے نہیں، چوری کا پیسہ ہضم نہیں کرنے دیں گے۔

ایک اور جعلی اکاوٴنٹ ہولڈر خاتون عدالت میں پیش ہوئیں جن کے نام پر اکاؤنٹ میں سوا ارب روپے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ غریب عورت ہوں ،عدالت نہیں آسکتی، مجھے کسی اکاؤنٹ اور رقم کا علم نہیں۔ شہری عدنان نے پیش ہوکر بتایا کہ ان کے نام پر بھی جعلی اکاوٴنٹ کھولے گئے جس میں آٹھ ارب روپے ہیں۔ سمٹ بینک منیجر کے بھائی احسن شاہ نے عدالت میں پیش ہوکر بتایا کہ مجھے گزری تھانے میں بلوا کر ہراساں کیا گیا،  لاڑکانہ میں ہماری زمینوں پربھی قبضہ کر لیا گیا۔

چیف جسٹس نے آئی جی سندھ پولیس جاوید سلیمی کی سخت سرزنش کرتے ہوئے کہا کہ کیوں نہ پولیس کیخلاف حبس بے جا کا مقدمہ درج کریں، مجھے معلوم ہے تم کس قسم کی نوکری کرتے ہو، معاملہ وزیراعظم کے نوٹس میں لاوٴں گا، کس کے کہنے پر لوگوں کو ہراساں کیا جا رہا ہے؟ بدھ کو عدالت میں رپورٹ پیش کریں، جس آنے والے وزیر کے کہنے پر سب ہوا اسے بھی جانتا ہوں۔

سپریم کورٹ نے ملزمان انور مجید، عبدالغنی، علی مجید اور ثمر مجید کو آئندہ سماعت پر پیش ہونے کا حکم دیا۔ عدالت نے کراچی پولیس چیف مشتاق مہر کو کیس سے فوری الگ کرنے کا حکم دیتے ہوئے بینکنگ کورٹ میں جاری کیس کی فائل بھی طلب کرلی اور سماعت جمعرات تک ملتوی کردی۔

مسلم لیگ (ن) نے شہباز شریف کو وزارت عظمیٰ کا امیدوار نامزد کردیا

لاہور: ترجمان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگزیب کا کہنا ہے کہ شہبازشریف اپوزیشن کی جانب سے وزارت عظمیٰ کے مشترکہ امیدوار ہوں گے۔

لاہور کے ماڈل ٹاؤن میں مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف کی زیر صدارت پارٹی کا اہم اجلاس ہوا جس کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے پارٹی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا کہ اجلاس میں 25 جولائی کے دھاندلی شدہ الیکشن کی مذمت کی گئی جب کہ شہبازشریف کو وزارت عظمیٰ  کا متفقہ امیدوار نامزد کیا گیا ہے۔

عمران خان کو دھاندلی شدہ مینڈیٹ دینے کی کوشش کی گئی

مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ عمران خان ووٹ چور ہیں، انہیں دھاندلی شدہ مینڈیٹ دینے کی کوشش کی گئی اور وہ خود ساختہ وزیراعظم بن بیٹھے، (ن) لیگ دیگر سیاسی جماعتوں کے ساتھ جدوجہد جاری رکھے گی اور تمام اعتراضات قوم کے سامنے لائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ 8 اگست کو اسلام آباد میں الیکشن کمیشن کے دفتر کے باہر احتجاج کیا جائے گا جس میں تمام سیاسی جماعتوں کے ٹکٹ ہولڈرز شامل ہوں گے۔

پارٹیوں کے ساتھ الائنس دھاندلی کے خلاف ہے

ترجمان مسلم لیگ (ن) نے کہا کہ تمام پارٹیوں کے ساتھ الائنس دھاندلی کے خلاف ہے اور انتخابات سے متعلق وائٹ پیپر مکمل کرنے کی ہدایت کی گئی ہے جب کہ آزاد امیدواروں کی منڈی لگی ہے لیکن (ن) لیگ کے نظریے کے ساتھ چلنے والے نمبر گیم میں شامل ہوں گے اور پنجاب میں حکومت کے لیے (ن) لیگ آزاد امیدواروں سے رابطے میں ہیں۔

لاہور ہائیکورٹ کا خواجہ آصف کی کامیابی کا بھی نوٹیفکیشن روکنے کا حکم

لاہور ہائی کورٹ نے الیکشن کمیشن کو این اے 73 سیالکوٹ سے مسلم لیگ (ن) کے رہنما خواجہ آصف کی بھی کامیابی کا نوٹی فکیشن روکنے کا حکم دے دیا۔

لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس مامون الرشید نے تحریک انصاف کے عثمان ڈار کی درخواست پر سماعت کی اور الیکشن کمیشن اور خواجہ آصف کو نوٹس جاری کرتے ہوئے خواجہ آصف کی کامیابی کا نوٹی فکیشن جاری کرنے سے روک دیا۔

پی ٹی آئی رہنما عثمان ڈار نے ایڈووکیٹ انیس ہاشمی اور ایڈووکیٹ تجمل گوندل کی وساطت سے لاہور ہائیکورٹ میں درخواست دائر کی جس میں مؤقف اختیار کیا کہ سیالکوٹ این اے 73 سے انتخاب لڑا اور دوسرے نمبر پر رہا۔ خواجہ آصف سے صرف 1406 وٹوں سے شکست ہوئی جب کہ میرے حلقے میں 7ہزار 346 ووٹ مسترد ہوئے اور ریٹرننگ افسر نے فارم 45 پولنگ ایجنٹس کو فراہم نہیں کیا۔

 درخواست گزار نے مؤقف اختیار کیا کہ ریٹرننگ افسر کو حلقے کی دوبارہ گنتی کی درخواست دی جسے مسترد کردیا گیا لہذا عدالت حلقے میں دوبارہ گنتی کروانے کا حکم صادر کرے اور عدالت دوبارہ گنتی مکمل ہونے تک خواجہ آصف کی کامیابی کے نوٹی فکیشن کو روکنے کا حکم دے۔

ریاستی دہشتگردی و انتہا پسندی کو جڑ سے اکھاڑنےکیلیے پرعزم ہیں، آرمی چیف

پاک فوج کے سربراہ جنرل قمرجاوید باجوہ کا کہنا ہے کہ ریاستی دہشت گردی و انتہا پسندی کو جڑ سے اکھاڑنے کے لیے پرعزم ہیں۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی چیف جنرل قمرجاوید باوجوہ کا آئی ایس پی آر میں انٹرن شپ پروگرام مکمل کرنے والے طلبا سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ اللہ نے پاکستان کو باصلاحیت نوجوان نسل سے نوازا ہے، پاکستان کامستقبل نوجوان نسل سے وابستہ ہے، ریاستی دہشت گردی و انتہا پسندی کو جڑ سے اکھاڑنے کے لیے پرعزم ہیں جب کہ  نوجوان نسل کا اس میں اہم کردار ہے۔

سربراہ پاک فوج نے کہا کہ جنگوں کا طریقہ کار اور اقسام تبدیل ہو چکی ہیں ہائبرڈ جنگ میں نوجوان نسل دشمنوں کا مرکزی ہدف ہے، نوجوان ایسے خطرات کو شکست دے کر پاکستان کو منزل تک لے جائیں۔ ان کا کہنا تھا کہ نوجوان اپنی صلاحیتوں کو پہچان کر پاکستان کو امن وخوشحالی کے نئے دور تک لے کر جائیں۔

 آرمی چیف نے فاٹا کے خیبر پختونخوا میں انضمام میں نوجوانوں کی کوششوں کو تسلیم کرتے ہوئے کہا کہ فاٹا کو قومی دھارے میں لانے کے اقدام سے دیرپا امن، استحکام اور معاشی  و سماجی ترقی آئے گی۔

روایتی طرزحکومت اپنایا تو تحریک انصاف بھی عوامی غضب کا نشانہ بنے گی، عمران خان

 اسلام آباد: عمران خان نے کہا کہ عوام نے 50 سال بعد دوجماعتی نظام کوشکست دی اور پی ٹی آئی نے روایتی طرز حکومت اپنایا تو وہ بھی عوامی غضب کا نشانہ بنے گی۔

اسلام آباد میں تحریک انصاف کی پارلیمانی پارٹی کے اجلاس سے خطاب کے دوران عمران خان نے کہا کہ 22 سالہ جدوجہد کا پہلا مرحلہ آج مکمل ہوا، اس کے لئے میں نے 22 برس تیاری کی، مجھ پرآج سب سے بڑی ذمہ داری آگئی ہے، تحریک انصاف کا اقتدار چیلنجزسے بھرپور ہے، عوام ہم سے روایتی طرزسیاست وحکومت کی امید نہیں رکھتے، اگر روایتی طرزحکومت اپنایا توعوام ہمیں بھی غضب کا نشانہ بنائیں گے، عوام آپ کا طرزسیاست اور کردار دیکھیں گے اور اس کے مطابق ردعمل دیں گے۔ میں خود مثال بنوں گا اور آپ سب کو بھی مثال بننے کی تلقین کروں گا، آج ہمیں اخلاقی طور پر کمزور ترین حزب اختلاف کا سامنا ہے۔

عمران خان نے کہا کہ حزب اختلاف کے پاس مولانا فضل الرحمان تو ہیں مگراخلاقی و روحانی قوت سے محروم ہے، آج اللہ نے آپ کو اخلاقی برتری دی ہے، آپ نے عوام کے پیسے کو اللہ کی امانت سمجھنا ہے، میں فیصلے میرٹ پر اور قوم کے مفاد کے لئے کروں گا اورمیں آپ سے اس کا تقاضا کبھی نہیں کروں گا جس پر میں خود عمل نہ کروں، برطانیہ کی طرز پر ہر ہفتے بطور وزیر اعظم ایک گھنٹہ سوالات کے جواب دیا کروں گا جب کہ وزراء کو بھی صحیح معنوں میں جوابدہ بنائیں گے۔

 عمران خان نے کہا کہ 1970 میں عوام نے مستحکم سیاسی اشرافیہ کو شکست دی، ایسا تاریخ میں شاذ و نادر ہی ہوتا ہے کہ دوجماعتی نظام میں تیسری جماعت کو موقع ملے، عوام تبدیلی کیلئے نکلے اور اپنا فیصلہ سنایا، پورے ملک میں جہاں امیدوار کا چہرہ تبدیلی سے نہیں ملتا تھا وہاں عوام نے مسترد کردیا۔

عمران خان نے کہا کہ سرمایہ اور ذہانت دونوں ہی خیبر پختونخوا سے نکل چکے تھے، ہم خیبر پختونخوا میں آئے تو 70 فیصد صنعتیں بند تھیں، اغواء برائے تاوان ایک صنعت بن چکا تھا، وہاں کے عوام نے تحریک انصاف کی حکومت کی کوششوں کو سراہا، عوام ہمیں روایتی سیاسی جماعتوں سے الگ دیکھتے ہیں اور آپ عوام کی امیدوں پر پورا اتریں اللہ آپ کو وہ عزت دے گا جس کا تصور بھی ممکن نہیں۔

عمران خان نے کہا کہ آپ نے بحثیت ٹیم مکمل اتحاد و اتفاق اپنانا ہے، عوام چاہتے ہیں کہ پارلیمان انکے لئے قانون سازی کرے، عوام نے آپ کو پارلیمان میں بھیجا ہے تاکہ آپ نچلے طبقے کو اوپر اٹھائیں، عوام آپ کی جانب دیکھ رہے ہیں کہ آپ انکے لئے پالیسیاں بنائیں، ہماری یہ جدوجہد پاکستان کا مستقبل بدل دے گی جب کہ جدوجہد سے بھرپور زندگی اتار چڑھاوٴ سے عبارت ہوتی ہے۔

عمران خان نے کہا کہ آپ نے بحثیت ٹیم مکمل اتحاد و اتفاق اپنانا ہے، عوام چاہتے ہیں کہ پارلیمان ان کے لئے قانون سازی کرے، عوام نے آپ کو پارلیمان میں بھیجا ہے تاکہ آپ نچلے طبقے کو اوپر اٹھائیں، عوام آپ کی جانب دیکھ رہے ہیں کہ آپ ان کے لئے پالیسیاں بنائیں، ہماری یہ جدوجہد پاکستان کا مستقبل بدل دے گی جب کہ جدوجہد سے بھرپور زندگی اتار چڑھاوٴ سے عبارت ہوتی ہے۔

 

’کالا باغ ڈیم سے متعلق صوبوں میں غلط فہمیاں ہیں‘

اسلام آباد: پاکستان کے نگراں وزیرِ اطلاعات بیرسٹر علی ظفر کا کہنا ہے کہ کالا باغ ڈیم سے متعلق صوبوں میں غلط فہمیاں ہیں جنہیں دور کرنے کی ضرورت ہے۔

وفاقی دارالحکومت میں پریس بریفنگ دیتے ہوئے نگراں وزیرِ اطلاعات کا کہنا تھا کہ ملک میں پانی کے ذخائر خطرناک حد تک کم ہوچکے ہیں جس کی وجہ سے پانی کی شدید قلت کا سامنا ہے۔

انہوں نے تجویز پیش کی کہ پانی کے استعمال میں بہتری لانے کی ضرورت ہے۔

بیرسٹر علی ظفر نے پریس بریفنگ کے دوران بتایا کہ ملک میں آبی بحران کے حل کے لیے 10 تجاویز زیرِ غور ہیں۔

کالا باغ ڈیم کے حوالے سے بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ اس سے متعلق صوبوں میں غلط فہمیاں ہیں، جنہیں دور کرنے کی ضرورت ہے۔

بھارت کی جانب سے کشن گنگا ڈیم کی تعمیر کے حوالے سے بات کرتے ہوئے بیرسٹر علی ظفر کا کہنا تھا کہ نئی دہلی نے دونوں ممالک کے درمیان ہونے والے سندھ طاس معاہدے کی خلاف ورزی کی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ معاہدے کے تحت دریائے جہلم، چناب اور سندھ پاکستان کے حصے میں آئے، لیکن بدقسمتی سے ہم معاہدے کے بعد صرف 2 ڈیم ہی بنا سکے۔

آئی ایم ایف کے معاملے میں کسی بھی ملک کی تنقید کو مسترد کرتے ہیں، بیرسٹر علی ظفر

قبلِ ازیں وزیر اطلاعات علی ظفر نے علاقائی یکجہتی کے موضوع پر سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے بغیر افغانستان میں قیام امن کا خواب شرمندہ تعبیر نہیں ہوسکتا اور امن کے بغیر خطے کا اتحاد ناممکن ہے۔

سید علی ظفر نے واضح کیا کہ پاکستان کو پانی کی قلت اور توانائی جیسے مسائل درپیش ہیں جبکہ اسے دہشت گردی، انتہا پسندی اور منی لانڈرنگ جیسے چیلنجز کا بھی سامنا ہے۔

پاک چین اقتصادی راہداری (سی پیک) کے حوالے سے بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ اس منصوبے کی تکمیل سے ملک میں غربت کا خاتمہ اور معاشرے میں عدم توازن ختم ہوگا۔

انٹرنیشنل مالیاتی ادارے آئی ایم ایف سے قرض لینے پر امریکی تنقید کا ردِ عمل دیتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ وہ اس معاملے پر کسی بھی ملک کی تنقید کو مسترد کرتے ہیں۔

انہوں نے واضح کیا کہ پاکستان روس، چین و دیگر ممالک سے علاقائی رابطے بڑھانا چاہتا ہے۔

نگراں وزیرِ اطلاعات کا کہنا تھا کہ ’ہم دنیا کی تیزی سے ابھرتی ہوئی معیشت ہیں، اور ہم بیشتر معاملات میں دنیا کے بہت سے ممالک سے آگے ہیں‘۔

’طیفا ان ٹربل‘ نے ہالی وڈ اور بالی وڈ فلموں کے ریکارڈز پاش پاش کردیئے

کراچی: گلوکار و اداکار علی ظفر اور مایا علی کی فلم ’طیفا اِن ٹربل‘ نے تیسرے ویک اینڈ پر پاکستان میں ریلیز ہونے والی تمام ہالی وڈ، بالی وڈ اور پاکستانی فلموں کے ریکارڈز توڑ دیئے ہیں۔

علی ظفر اور مایا علی کی ایکشن کامیڈی ’طیفا ان ٹربل‘ اب تک ملک بھر کے سنیما گھروں سے صرف 17 روز میں 22 کروڑ 44 لاکھ کا بزنس کرچکی ہے۔

فلم کا دنیا بھر میں بھی بزنس کامیابی سے جاری ہے اور فلم نے 17 روز میں پاکستان سمیت دنیا بھر میں مجموعی طور پر 30 کروڑ سے زائد کی کمائی کی ہے۔

فلم نے اپنی ریلیز کے تیسرے ویک اینڈ پر ریکارڈ توڑ 3 کروڑ  60 لاکھ سے زائد کا بزنس کرکے پاکستان میں ریلیز ہونے والی تمام ہالی وڈ، بالی وڈ اور پاکستانی فلموں کے ریکارڈ توڑ دیئے ہیں۔

فلم اب تک نان ہالیڈے یعنی کسی عید اور تہوار کی چھٹیوں کی مدد کے بغیر کئی ریکارڈز اپنے نام کرچکی ہے۔

جیو فلمز، لائٹ اینگل پروڈکشنز، مانڈوی والا انٹرٹینمنٹ اور ٹیڈ پول فلمز نے طیفا کے دیوانوں کا ریکارڈ بنانے پر شکریہ ادا کیا ہے اور امید ظاہر کی ہے کہ طیفا اور طیفا کے دیوانے اس فلم کو پاکستان کی سب سے کامیاب فلم کا اعزاز بھی دلوائیں گے۔

فلم کی میوزک اور گانے بھی یو ٹیوب پر مقبول ترین فلمی گانوں کے ریکارڈ اپنے نام کرچکے ہیں۔

’طیفا ان ٹربل‘ میں علی طفر اور مایا علی کے علاوہ جاوید شیخ، فیصل قریشی، محمود اسلم اور نیئر اعجاز نے بھی اہم کردار کیا ہے جب کہ فلم کو احسن رحیم نے ڈائریکٹ کیا ہے۔

Google Analytics Alternative