Home » 2018 » September » 11

Daily Archives: September 11, 2018

عمران خان کی چیئرمین واپڈا سے ملاقات، دیامربھاشا اور مہمند ڈیمز کی جلد تعمیر پر زور

اسلام آباد: وزیراعظم پاکستان عمران خان نے واٹر اینڈ پاور ڈویلپمنٹ اتھارٹی (واپڈا) کے چیئرمین سے ملاقات کی جس میں انہوں نے دیامر بھاشا اور مہمند ڈیمز کی جلد تعمیر پر زور دیا۔

وزیراعظم عمران خان نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری پیغام میں کہا کہ انہوں نے جنرل (ر) مزمل حسین نے وزیراعظم ہاؤس میں ملاقات کی۔

عمران خان نے بتایا کہ انہوں نے چیئرمین واپڈا پردیامر بھاشا اورمہمند ڈیمز کی جلد تعمیر پر زور دیا ہے اور کہا ہے کہ میں خود ڈیمز کے منصوبوں کی نگرانی کرسکتا ہوں۔

وزیراعظم عمران خان نے مزید کہا کہ پاکستان میں دو بڑے ڈیموں سمیت صرف 185 ڈیمز ہیں جبکہ اس کے برعکس بھارت میں 5ہزار اور چین میں 4 ہزار بڑے ڈیموں سمیت 84 ہزار ڈیمز ہیں۔

عمران خان نے مزید کہا کہ ہمیں پاکستان کو بڑھتے ہوئے آبی بحران سے محفوظ بنانا ہے، چیئرمین واپڈا سے ملاقات کے دوران دیامر بھاشا اور مہمنڈ ڈیمز کی جلد تکمیل پر زور دیا ہے اور ان سے کہا ہے کہ معاملے کی افادیت کے پیش نظر منصوبے کی نگرانی میں اپنے ذمے لے سکتا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کے حصے میں سالانہ 45 ملین ایکڑ فٹ پانی آتا ہے جس کا 80 فیصد 3 ماہ جبکہ بقیہ 20 فیصد باقی 9 ماہ میں آتا ہے۔

‘پاکستان کو قرضوں پر سود ادا کرنےکے لیے عالمی اداروں سےامداد لینا پڑتی ہے’

قبل ازیں اپنے ٹوئٹر پیغام میں وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ پاکستان کو قرضوں پر سود ادا کرنےکے لیے عالمی اداروں سےامداد لینا پڑتی ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر بیان میں وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ وفاق، خیبرپختونخوا اور پنجاب میں سرکاری زمین، رہائش گاہوں کے 90 فیصد اعداد و شمار ملے ہیں، سرکاری زمین کی مالیت سے متعلق اعداد و شمار ہوش اڑا دینے کی حد تک حیرت ناک ہیں۔

Imran Khan

@ImranKhanPTI

I have just got figures of 90% of state-owned land in KP, Punjab & federal areas & rest houses/official residences built on this land. The figures are startling: 34,459 kanals are rural & 17,035 kanals are urban.Just the urban land with buildings is worth over Rs.300 billion!

انہوں نے کہا کہ 34,459 کنال سرکاری زمین دیہی،17,035 کنال سے زائد شہری علاقوں میں ہے، صرف شہری زمین پر تعمیرات کی مالیت 300 ارب روپے سے زائد ہے۔

وزیراعظم کاکہنا تھا کہ پاکستان کو قرضوں پر سود ادا کرنےکے لیے عالمی اداروں سےامداد لینا پڑتی ہے، پاکستان جیسا ملک کیسے 300 ارب روپے ایک جگہ منجمد کرسکتا ہے؟

Imran Khan

@ImranKhanPTI

So a country that has to borrow money to pay interest on its loans (burdening our future generations) – & daily interest payment is Rs 5 b – is sitting on huge amounts of dead capital (just 90% of urban holdings is worth Rs 300b) in the form of this govt-owned land with buildings

Imran Khan

@ImranKhanPTI

I have just got figures of 90% of state-owned land in KP, Punjab & federal areas & rest houses/official residences built on this land. The figures are startling: 34,459 kanals are rural & 17,035 kanals are urban.Just the urban land with buildings is worth over Rs.300 billion!

آرمی چیف کی چیف جسٹس سے ملاقات، ڈیمز فنڈ کیلیےایک ارب سے زائد کا چیک پیش کیا

اسلام آباد: آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ نے چیف جسٹس پاکستان میاں ثاقب نثار سے ملاقات کرکے انہیں ڈیمز فنڈ کے لیے  ایک ارب 59 لاکھ سے زائد کی رقم کا چیک پیش کیا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ نے چیف جسٹس پاکستان میاں ثاقب نثار سے سپریم کورٹ میں ملاقات کی جس میں انہوں نے ڈیمز فنڈ کے لیے ایک ارب روپے سے زائد کی رقم کا چیک پیش کیا، اس موقع پر آرمی چیف کا کہنا تھا کہ قوم کی تعمیر و ترقی میں پاک فوج اپنا کردار ادا کرتی رہے گی۔

آرمی چیف  نے چیف جسٹس کو ایک خط بھی دیا جس میں پاک فوج کی جانب سے ڈیمز فنڈ کے لیے جمع کی گئی رقم  کی تفصیلات شامل ہیں۔

خط کے متن میں کہا گیا کہ مجموعی طور پر ایک ارب 59 لاکھ روپے سے زائد کی رقم جمع کرکے سپریم کورٹ ڈیمز فنڈ میں جمع کرائی جارہی ہے، آرمی افسران نے اپنی 2 دن کی تنخواہ جب کہ جونیئر کمیشنڈ افسران اور اہلکاروں کی جانب سے ایک دن کی تنخواہ ڈیمز فنڈ میں دی گئی۔

واضح رہے کہ چند روز قبل وزیراعظم عمران خان نے  پاکستانیوں سے ڈیمز فنڈ میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینے کی اپیل کرتے ہوئے کہا تھا کہ امریکا اور یورپ میں مقیم ہر پاکستانی ایک ہزار ڈالر یا اس سے زائد رقم بھیجیں۔

وزیراعظم عمران خان کی جانب سے اعلان کے بعد بیرون ملک مقیم پاکستانیوں سمیت پاکستانی اداکاروں، کرکٹ ٹیم کے کھلاڑیوں اور صنعت کاروں سمیت دیگر افراد نے ڈیمز فنڈ کے لیے رقوم عطیہ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

حکومت نے گیس کی قیمتوں میں اضافہ موخر کردیا

اسلام آباد: اقتصادی رابطہ کمیٹی نے گیس کی قیمتوں میں اضافے کے معاملے کو موخر کردیا ہے۔

اسلام آباد میں وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر کی زیر صدارت اقتصادی رابطہ کمیٹی کا اجلاس ہوا۔ جس میں گیس کی قیمتوں میں اضافے کے اطلاق اور ایجنڈے میں شامل دیگر معاملات پر غور کیا گیا۔ اجلاس میں گیس کی قیمتوں میں اضافے کا معاملہ ایک بار پھر موخر کر دیا گیا۔ قیمتوں میں اضافے سے متعلق اسٹیک ہولڈرز سے مشاورت کی جائےگی جب کہ حتمی فیصلہ وزیراعظم عمران خان کریں گے۔

اقتصادی رابطہ کمیٹی نے فیصلہ کیا کہ ملک کی تمام کھاد فیکٹریاں اپنی پوری صلاحیت کے مطابق کھاد پیدا کریں گی، اس کے لئے کھاد فیکٹریوں کو 50 فیصد مقامی گیس اور 50 فیصد ایل این جی مہیا کی جائے گی، ایل این جی کا 50 فیصد بل کھاد کمپنیاں جب کہ 50 فیصد حکومت ادا کرے گی۔

اجلاس کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے وفاقی وزیراطلاعات فواد چوہدری  نے بتایا کہ پاکستان میں گیس کا سیکٹر تباہ و برباد ہوا ہے،اس کے علاوہ گیس کی چوری میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ گیس کی قیمتوں میں اضافہ فی الحال نہیں کیاجارہا، اس سلسلے میں سبسڈی کا نظام وضع اور تبدیلیاں لائی جائیں گی۔

واضح رہے کہ اوگرا نے گیس کی قیمتوں میں 180 فیصد اضافے کی تجویز دی تھی تاہم وزیراعظم عمران خان نے گیس کی قیمتوں میں 46 فیصد اضافے کی منظوری دی تھی۔

شانگلہ کی صوبائی نشست پر تحریک انصاف کے شوکت یوسف زئی کامیاب

شانگلہ: خیبر پختون خوا اسمبلی کے حلقہ ’پی کے 23‘ شانگلہ میں تحریک انصاف کے امیدوار شوکت یوسف زئی نے 20 ہزار ووٹوں کی برتری سے کامیابی حاصل کرلی۔

شانگلہ میں تمام 135 پولنگ اسٹیشنز میں ووٹوں کی گنتی مکمل کرلی گئی اور غیرحتمی نتائج سامنے آگئے جس کے مطابق تحریک انصاف کے امیدوار شوکت علی یوسفزئی 42  ہزار 116 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے اور انہوں نے تقریباً 20 ہزار ووٹوں کی برتری حاصل کی۔ ان کے مدمقابل مسلم لیگ (ن) کے امیدوار محمد روشاد خان 22 ہزار 315 ووٹ کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

خیبر پختون خوا اسمبلی کے ضلع شانگلہ میں دوبارہ الیکشن کے لیے پولنگ صبح 8 بجے شروع ہوئی جو شام 6 بجے تک جاری رہی۔ اس موقع پر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے جب کہ پاک فوج کے جوان بھی تعینات تھے۔

حلقے میں مجموعی طور پر رجسٹرڈ ووٹرز کی تعداد  2 لاکھ 555 ہے جن میں مرد ووٹرز کی تعداد 1 لاکھ 13 ہزار 827 اور خواتین کی تعداد 86 ہزار 728 ہے۔ حلقے کی کئی یونین کونسلز میں خواتین نے پہلی بار ووٹ کاسٹ کیا۔

یاد رہے کہ الیکشن کمیشن نے 25 جولائی کو عام انتخابات میں خواتین کے ووٹوں کی شرح بہت کم ہونے پر شانگلہ میں دوبارہ پولنگ کا حکم دیا تھا۔ الیکشن میں پی ٹی آئی کے شوکت یوسفزئی نے 17399 ووٹ لے کر کامیابی حاصل کی تھی جب کہ (ن) لیگ کے روشاد خان 15 ہزار 533 ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہے تھے۔

اس حلقے میں خواتین رائے دہندگان کی تعداد 86 ہزار ہے لیکن 25 جولائی کو صرف ساڑھے 3 ہزار خواتین نے ووٹ ڈالے تھے۔ الیکشن کمیشن کے قوانین کے مطابق خواتین کا ٹرن آؤٹ 10 فیصد ہونا ضروری ہے۔

آرمی چیف نے 13 دہشتگردوں کی سزائے موت کی توثیق کردی

راولپنڈی:  آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ  نے 13 دہشت گردوں کی سزائےموت کی توثیق کردی ہے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ  نے 202 افراد کے قتل میں ملوث 13 دہشت گردوں کی سزائےموت کی توثیق کردی ہے، جب کہ 7 دیگر دہشت گردوں کو قید کی سزا بھی سنائی گئی ہے۔ ان دہشت گردوں کے خلاف ملٹری کورٹ میں مقدمات چلائے گئے اور انہوں نے عدالت کے سامنے اعتراف جرم کیا۔

سزائے موت پانے والوں میں منیر احمد ،محمد بشیر،حافظ عبداللہ،بخت اللہ خان،شاہ خان،محمد سہیل خان ،داؤد شاہ، محمد منیر، حبیب اللہ ،محمد آصف، گل شاہ ، جلال حسین اور علی شیر شامل ہیں۔ آئی ایس پی آر کے مطابق یہ تمام دہشت گرد مسلح افواج، قانون نافذ کرنے والے اداروں پر حملوں، تعلیمی اداروں کی تباہی اور عام شہریوں کے قتل میں ملوث تھے، اور ان پر مجموعی طور پر 202 افراد کے قتل کا الزام ثابت ہوا، جب کہ دہشت گردوں کے قبضے سے دھماکا خیز مواد بھی برآمد ہوا ہے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق دہشت گرد منیر احمد اورکزئی ایجنسی میں قومی لشکر جرگہ پر حملے میں ملوث ہے، حملے میں114 شہری شہید ہوئے تھے، دہشت گرد منیر احمد مسلح افواج پرحملے میں بھی ملوث تھا، اور اس کے حملے میں 6 سپاہی شہید اور 9 زخمی ہوئے تھے، دہشت گرد محمد بشیر ڈی آئی خان میں سینیٹر عطاالرحمان کے گھر اور رشید اکبر نوانی کے گھر پر حملوں میں ملوث ہے، حملوں میں 21 شہری شہید اور 59 زخمی ہوئے تھے۔

آئی ایس پی آر کےمطابق دہشت گرد حافظ عبداللہ بھی دہشت گرد تنظیم کا ممبر اور قانون نافذ کرنے والی ایجنسیز پر حملے میں ملوث ہے، دہشت گرد حافظ عبداللہ کے حملے میں لیفٹیننٹ کرنل انور عباسی تین سپاہیوں سمیت شہید اور15زخمی ہوئے تھے۔ دہشت گرد بخت اللہ خان بھی کالعدم تنظیم کا ممبر اوردہشت گرد حملے میں ملوث ہے جس میں 3 حوالدار اور 14 سپاہی شہید اور  39 زخمی ہوئے تھے۔ دہشت گرد شاہ خان کالعدم تنظیم کا رکن اور قانون نافذ کرنے والی ایجنسیز پر حملے میں ملوث ہے جس میں 2حوالدار اور7 سپاہی شہید ہوئے تھے جب کہ 86 زخمی ہوئے۔

دہشت گرد محمد سہیل کوہاٹ ٹنل پر خود کش حملے میں ملوث ہے، حملے میں 5 شہری شہید اور 15 افراد زخمی  ہوئے تھے۔ دہشت گرد داؤد شاہ فوج اور شہریوں پر حملوں میں ملوث ہے اور اس کے حملوں میں 2 حوالدار اور 3 سپاہی شہید جب کہ چار زخمی ہوئے تھے۔ دہشت گرد محمد منیر قانون نافذ کرنے والی ایجنسیز پر حملوں میں ملوث ہے، جس کے  نتیجے  میں 2 پولیس کانسٹیبلز اور 2 دیگر اہلکار شہید جب کہ12 زخمی ہوئے تھے۔ دہشت گرد حبیب اللہ بھی کالعدم تنظیم کا رکن اور فوجیوں پر حملے میں ملوث ہے، اس کے حملے میں ایک سپاہی شہید اور 3 زخمی ہوئے، جبکہ دہشت گرد نے سوات میں واقع اسکول بھی تباہ کیا تھا۔

دہشت گرد محمد آصف 2 شہریوں اور پولیس ہیڈ کانسٹیبل شاہین اسلام کے قتل میں ملوث ہے۔ دہشت گرد گل شاہ قانون نافذ کرنے والی ایجنسیز پرحملے میں ملوث ہے اس کے حملے میں 5 سپاہی شہید ہوئے۔ دہشت گرد جلال حسین کالعدم تنظیم کا رکن اور قانون نافذ کرنے والی ایجنسیز پر حملے میں ملوث ہے، جس میں 2 سپاہی شہید ہوئے۔ دہشت گرد علی شیر کالعدم  تنظیم کا ممبر اور ایک سپاہی کے قتل اور سوات میں اسکول تباہ کرنے میں ملوث ہے۔

آر ٹی ایس سے پریذائیڈنگ افسران کی لاعلمی اور انٹرنیٹ نہ ہونے پر مسائل پیدا ہوئے، نادرا رپورٹ

اسلام آباد: عام انتخابات میں آر ٹی ایس فیل ہونے سے متعلق تحقیقاتی رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ بیشتر پریذائیڈنگ اور اسسٹنٹ پریذائیڈنگ افسران کے پاس اسمارٹ فون نہیں تھے اور وہ ٹیکنالوجی کے استعمال کی مہارت نہیں رکھتے تھے جب کہ انٹرنیٹ نہ ہونے پر بھی مسائل پیدا ہوئے۔

عام انتخابات 2018ء میں رزلٹ ٹرانسمیشن سسٹم  (آر ٹی ایس) فیل ہونے سے متعلق نادرا نے ابتدائی رپورٹ مرتب کرکے الیکشن کمیشن کو بھجوا دی جب کہ الیکشن کمیشن نے بھی نادرا کی جانب سے موصول ہونے والی رپورٹ کی تصدیق کردی ہے۔

رپورٹ کے مطابق آرٹی ایس 25 جولائی کو ٹھیک کام کررہا تھا، 25 جولائی 6 بجے سے 27 جولائی شام 4 بجے تک آرٹی ایس سے نتائج موصولی کا عمل جاری رہا، نادرا نے آر ٹی ایس کے بین الاقوامی معیار کا بیک اپ تیار کیا تھا، رزلٹ ٹرانسمیشن سسٹم اور رزلٹ مینجمنٹ سسٹم میں کوئی مماثلت نہیں تھی۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ آر ٹی ایس میں ڈیٹا فیڈ کرنے کا اختیار صرف پریذائیڈنگ اور اسسٹنٹ پریذائیڈنگ افسران کو تھا، ابتداء میں آر ٹی ایس کے ذریعے رزلٹ کی آمد جاری تھی، انتخابی عملے کو آرٹی ایس سافٹ ویئر کے استعمال کرنے میں مختلف وجوہات رکاوٹ کا باعث بنیں۔

رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ تھری جی انٹرنیٹ کی عدم دستیابی بھی رزلٹ فارم کی آرٹی ایس ترسیل میں بڑی رکاوٹ رہی، بیشتر پریذائیڈنگ اور اسسٹنٹ پریذائیڈنگ افسران ٹیکنالوجی کے استعمال کی مہارت نہیں رکھتے تھے اور ان کے پاس اسمارٹ فون بھی دستیاب نہیں تھے، پریذائیڈنگ افسران کی اسمارٹ فون سے لاعلمی، موبائل چارجنگ کے مسائل اور انٹرنیٹ ڈیٹا پیکجز نہ ہونے کے باعث نتائج آر ٹی ایس کے ذریعے ارسال نہ کیے جاسکے۔

رپورٹ کے مطابق الیکشن کمیشن کی رات 2 بجے سے قبل غیرحتمی اور غیر سرکاری نتائج کا دباؤ بھی ناکامی کا سبب بنا رہا، 2 بجے کی ڈیڈ لائن کے لیے الیکشن کمیشن نے آر ٹی ایس کو بائی پاس کرنے کے احکامات جاری کیے، آر ٹی ایس کا بالواسطہ یا بلاواسطہ کوئی تعلق نہیں تھا کہ وہ کسی حلقے کے نتائج مرتب کرے۔

سی پیک پر میرا انٹرویو سیاق و سباق سے ہٹ کر پیش کیا گیا، مشیر تجارت

 اسلام آباد: مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد کا کہنا ہے کہ سی پیک کے حوالے سے میرے انٹرویو کے کچھ حصے سیاق و سباق سے ہٹ کر پیش کیے گئے۔

برطانوی اخبار کو سی پیک کے حوالے سے دیے گئے انٹرویو پر مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد کا کہنا ہے کہ سی پیک کے بارے میں میرے انٹرویو کے کچھ حصوں کو سیاق و سباق سے ہٹا کر پیش کیا گیا۔

دوسری جانب وزات تجارت نے بھی عبدالرزاق داوٴد سے متعلق فنانشل ٹائمز کی خبر پر تردید کردی ہے۔ وزارت تجارت کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ سی پیک کے مستقبل پر پاکستان اور چین کے درمیان اتفاق ہے، پاکستان سی پیک کو رول بیک نہیں کررہا، پاکستان نے چین کے وزیر خارجہ کو یقین دہانی کرائی ہے کہ سی پیک قومی ترجیحی منصوبہ ہے،وزیر اعظم کے مشیر کے بیان کو سیاق و سباق سے ہٹ کر چھاپا گیا ہے۔

واضح رہے کہ برطانوی اخبار فنانشل ٹائمز نے دعویٰ کیا ہے کہ پاکستانی حکومت چین کے ساتھ ہونے والے سی پیک معاہدوں پر دوبارہ غور کرے گی اور نئے سرے سے شرائط طے کی جائیں گی۔

اخبار کے مطابق مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد کا کہنا ہے کہ سی پیک معاہدوں میں پاکستانی کمپنیوں کو نقصان پہنچ رہا ہے اور چینی کمپنیاں ناجائز فائدہ اٹھارہی ہیں لہذا سی پیک منصوبوں کو ایک سال کے لیے روک دینا چاہیے۔

محرم الحرام کا چاند نظر نہیں آیا، یوم عاشور 21 ستمبر کو ہوگا

کراچی: مرکزی رویت ہلال کمیٹی نے محرم الحرام 1440 ہجری کا چاند نظر نہ آنے کا اعلان کردیا جس کے بعد یوم عاشور 21 ستمبر بروز جمعہ کو ہوگا۔ 

محرم الحرام کا چاند دیکھنے کیلئے مرکزی رویت ہلال کمیٹی کا اجلاس چیئرمین مفتی منیب الرحمان کی زیر صدارت کراچی میں ہوا جس میں محکمہ موسمیات اور وزارت مذہبی امور کے حکام  سمیت زونل رویت ہلال کمیٹی کے ارکان بھی شریک تھے۔

دوسری جانب زونل کمیٹیوں کے اجلاس لاہور، کوئٹہ اور پشاور میں ہوئے تاہم کسی بھی مقام سے چاند کی کوئی شہادت موصول نہیں ہوئی جس کے بعد چیئرمین مرکزی رویت ہلال کمیٹی مفتی منیب الرحمن نے چاند نظر نہ آنے کا اعلان کیا۔

واضح رہے محکمہ موسمیات نے یکم محرم الحرام 12 ستمبر بروز بدھ اور 10 محرم یوم عاشور 21 ستمبر بروز جمعہ کو ہونے کی پیش گوئی کی تھی۔

Google Analytics Alternative