Home » 2018 » October » 03

Daily Archives: October 3, 2018

رانا مشہود کا بیان بے بنیاد اور افسوس ناک ہے، ترجمان پاک فوج

 راولپنڈی: ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے (ن) لیگ کے رہنما رانا مشہود کے بیان پر کہا ہے کہ ان کا بیان بے بنیاد اور افسوس ناک ہے۔

پاک فوج کے ترجمان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر رانا مشہود کے بیان پر ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ رانا مشہود کا بیان افسوس ناک اور بے بنیاد ہے، ایسے غیر ذمہ دارانہ بیانات ملکی استحکام کے لیے نقصان دہ ہیں۔

واضح رہے مسلم لیگ (ن) کے رہنما رانا مشہود نے اپنے ایک بیان کہا ہے کہ اب اسٹیبلشمنٹ سے ہمارے معاملات ٹھیک ہوگئے ہیں اور اسی طرح چلتا رہا تو 2 ماہ کے بعد پنجاب میں (ن) لیگ دوبارہ حکومت بنائے گی۔

دوسری جانب ترجمان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگزیب نے رانا مشہود کی جانب سے پارٹی اور اسٹیبلشمنٹ میں معاملات ٹھیک ہونے کے بیان سے لاتعلقی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ معاملات طے پانے کا بیان رانا مشہود کا ذاتی بیان ہے اس سے پارٹی قیادت کا کوئی تعلق نہیں اور اس بیان پر رانا مشہود سے جواب طلب کیا جارہا ہے۔

آرمی چیف تین روزہ دورے پر اردن پہنچ گئے

راولپنڈی: آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ تین روزہ دورے پر اردن پہنچ گئے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف تین روزہ دورے پر اردن پہنچے جہاں انہوں نے اردن کے شاہ عبداللہ کے ساتھ ملاقات کی۔ ملاقات میں علاقائی سلامتی کی صورتحال سمیت دو طرفہ امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ اردن کے بادشاہ نے پاکستان کے ساتھ تعاون بڑھانے کی خواہش ظاہر کی اردن کے بادشاہ نے جنرل قمر جاوید باجوہ کو آرڈر آف دی ملٹری میرٹ کے اعزاز سے نوازا۔

اس موقع پر آرمی چیف کا کہنا تھا کہ پاکستان اردن کے ساتھ تعلقات کو انتہائی اہمیت دیتا ہے پاکستان تعاون بڑھانے کے اردن کے ہر مثبت اقدام کو خوش آمدید کہے گا۔

قبل ازیں آرمی چیف نے اردن کی مسلح افواج کے جوائنٹ چیفس آف اسٹاف لیفٹیننٹ جنرل محمود عبدالحلیم فریحات سے بھی ملاقات کی جس میں آرمی چیف نے افواج کی تربیت و مشترکہ مشقوں اور دفاعی تعلقات میں مکمل تعاون کی پیش کش کی۔

پاکستانی وزیر خارجہ کی امریکا کے قومی سلامتی کے مشیر سے ملاقات

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے وائٹ ہاؤس میں امریکی قومی سلامتی کے مشیر جان بولٹن سے ملاقات کی، جس میں دو طرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

دفتر خارجہ کے جاری بیان میں بتایا گیا کہ ملاقات میں دونوں رہنماؤں نے پاکستان اور امریکا کے درمیان دو طرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا۔

اس کے علاوہ دونوں رہنماؤں نے خطے کی صورتحال پر بھی تبادلہ خیال کیا۔

واضح رہے کہ وزیر خارجہ اس وقت امریکا کے سرکاری دورے پر ہیں۔

اپنے دورے کے دوران انہوں نے نیویارک میں 24 ستمبر سے ہونے والے اقوام متحدہ کے جنرل اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کی۔

29 ستمبر کو انہوں نے جنرل اسمبلی کے اجلاس سے خطاب بھی کیا تھا۔

اپنے دورے کے دوران شاہ محمود قریشی نے 24 ستمبر کو امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے بھی ملاقات کی تھی۔

اس ملاقات کے حوالے سے انہوں نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ امریکی صدر نے پاکستان سے تعلقات کی از سرنوبحالی پر اتفاق کیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ‘میں نے ان سے گزارش کی کہ ہمارا ایک دیرینہ تعلق رہا ہے اور ہمیں اپنے تعلقات کو دوبارہ بحال کرنے کی ضرورت ہے اور صدر ٹرمپ نے اتفاق کیا’۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ ‘مجھے ان کا رویہ مثبت دکھائی دیا اور انہوں نے کہا کہ بالکل ہم تعلقات بحال کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں’۔

(ن) لیگ کا رانا مشہود کے بیان سے اظہار لاتعلقی

اسلام آباد: ترجمان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگزیب نے رانا مشہود کی جانب سے پارٹی اور اسٹیبلشمنٹ میں معاملات ٹھیک ہونے کے بیان سے لاتعلقی کا اظہار کردیا۔

رانا مشہود کے بیان پر ردعمل دیتے ہوئے ترجمان مسلم لیگ (ن) نے کہا کہ معاملات طے پانے کا بیان رانا مشہود کا ذاتی ہے اس سے پارٹی قیادت کا کوئی تعلقی نہیں، بیان باعث تعجب ہے اس بیان پر رانا مشہود سے جواب طلب کیا جارہا ہے۔

(ن) لیگ کے رہنما رانا مشہود نے دعویٰ کیا تھا  کہ اب اسٹیبلشمنٹ سے ہمارے معاملات ٹھیک ہوگئے ہیں اور معاملات کو درست کرنے میں شہباز شریف کا بہت بڑا کردار ہے، اسی طرح چلتا رہا تو 2 ماہ کے بعد پنجاب میں (ن) لیگ دوبارہ حکومت بنائے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ ُانہیں اب سمجھ آگئی ہے، جسے گھوڑا سمجھا تھا وہ خچر نکلا ہے، ادارے میں بیٹھے تھنک ٹینک کو نظر آرہا ہے کہ یہ صرف جھوٹ پرچلنے والے لوگ ہیں، اب مجموعی ماحول میں انہوں نے بھی سمجھا ہے اور ہمیں بھی احساس ہوا ہے۔

ای سی سی اجلاس میں بجلی کی قیمتیں نہ بڑھانے کا فیصلہ

 اسلام آباد: کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں بجلی کی قیمتیں نہ بڑھانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

اسلام آباد میں وزیر خزانہ اسد عمر کی صدارت میں کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں بجلی کی قیمتیں نہ بڑھانے کا فیصلہ کیا گیا، اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو میں وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ بجلی کی قیمتیں نہ بڑھانے کا فیصلہ کیا گیا ہے، اس کے علاوہ اجلاس میں بجلی کے لائن لاسز میں کمی کے لیے اہم فیصلوں کی بھی منظوری دی گئی۔

ای سی سی نے پاکستان اسٹیل ملز کے ملازمین کو اگست کی تنخواہوں کی ادائیگی کے لیے فنڈز اور تمباکو کے لیے سیس کے نظر ثانی شُدہ ریٹ کی منظوری دیدی۔ اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں کے الیکٹرک کے مسائل حل کرنے کے لیے کمیٹی بھی قائم کردی گئی ہے جس میں خزانہ و پاور ڈویژن، وزارت پٹرولیم اور آڈیٹر جنرل آف پاکستان کے حکام شامل ہوں گے۔

بھارت میں 70 ہزار کسان مودی سرکار کے خلاف سراپا احتجاج

دلی: بھارت میں مودی سرکار کی پالیسی سے پریشان 70 ہزار کسان سڑکوں پر نکل آئے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ریاست اتر پردیش کے ضلع غازی آباد میں 70  ہزار سے زائد غریب کسان حکومتی پالیسیوں کے خلاف سڑکوں پر نکل آئے۔ کسان ہاتھوں میں پلے کارڈز اور بینرز اُٹھائے ٹریکٹروں، ٹرالر اور ٹرکوں پر سوار نئی دہلی کی جانب مارچ کر رہے ہیں۔

India 1

کسانوں نے حکومت سے مہنگائی کم کرنے اور قرضوں کی معافی کا مطالبہ کیا ہے۔ مظاہرین کو دارالحکومت پہنچنے سے روکنے کے لیے پولیس نے رکاوٹیں کھڑی کردیں جسے کسانوں نے ہٹانے کی کوشش تو پولیس نے طاقت کا مظاہرہ کرتے ہوئے لاٹھی چارج کیا۔

India 2

آنسو گیس کی شیلنگ اور واٹر کینن کے بے دریغ استعمال کے باعث درجنوں کسان زخمی ہوگئے۔ مظاہرین نے مودی سرکار کے خلاف شدید نعرے بازی کی اور پولیس کی جانب سے طاقت کے بے دریغ استعمال پر شدید احتجاج کیا۔

India 3
پولیس اور مظاہرین کے درمیان مذاکرات ناکام ہونے کے بعد کسانوں نے مارچ ختم کر کے واپس جانے سے انکار کردیا۔ کسی بھی ممکنہ صورت حال سے نمٹنے کے لیے دارالحکومت میں دفعہ 144 نافذ کردی گئی ہے اور پولیس کی بھری نفری تعینات ہے۔

دوسری جانب اترپردیش کے وزیراعلیٰ نے بی جے پی کی حکومت کو کسانوں کا مسیحا بناکر پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ نریندرا مودی نے کسانوں کے تمام مسائل کو حل کردیا ہے اور 1947 کے بعد یہ پہلا موقع ہے جب کسان اور حکومت ہم نوالہ و ہم پیالہ ہیں۔ یہ سب بی جے پی کی ساڑھے 4 سالہ دورِ اقتدار کے باعث ممکن ہوا۔

واضح رہے کہ مودی سرکار کی کسان مخالف پالیسیوں کے خلاف مختلف اوقات میں آوازیں اُٹھتی رہی ہیں لیکن اتنے بڑے پیمانے پر احتجاجی مظاہرہ پہلی مرتبہ دیکھنے میں آئی ہے۔

نندی پورپراجیکٹ ریفرنس؛ راجہ پرویز اشرف اور بابر اعوان پر فرد جرم عائد کرنے کا فیصلہ

 اسلام آباد: احتساب عدالت نے نندی پور پاور پراجیکٹ ریفرنس میں سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف اور رہنما تحریک انصاف بابر اعوان پر فردِ جرم عائد کرنے کے لیے 24 اکتوبر کی تاریخ مقرر کردی۔ 

اسلام آباد کی احتساب عدالت نے نندی پور پاور پراجیکٹ میں تاخیر پر دائر ریفرنس میں سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف اور رہنما تحریک انصاف بابر اعوان پر فرد جرم عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے، ملزمان پر فرد جرم عائد کرنے کے لیے 24 اکتوبر کی تاریخ مقرر کی گئی ہے۔

احتساب عدالت نے ساتوں ملزمان کو حاضری یقینی بنانے اور ریفرنس کی کاپیاں فراہم کرنے کا حکم دیا ہے۔

واضح رہے کہ نیب راولپنڈی نے نندی پور پراجیکٹ میں تاخیر پر رہنما تحریک انصاف بابر اعوان اور سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف سمیت 7 ملزمان کے خلاف ریفرنس دائر کیا تھا، ریفرنس کے مطابق ان تمام ملزمان کی غفلت کی وجہ سے نندی پور پاور پراجیکٹ میں تاخیر ہوئی جس کے نتیجے میں قومی خزانے کو 27 ارب روپے کا نقصان ہوا۔

’جنسی طور پر پرکشش نہ ہونے کی وجہ سے مسترد کیا گیا‘

امریکی گلوکارہ و اداکارہ لیڈی گاگا کی آنے والی پہلی فلم ‘اے اسٹار از بارن’ کے ڈائریکٹر بریڈلی کوپر نے حیران کن انکشاف کرتے ہوئے کہا ہے کہ کیریئر کے ابتدائی دور میں انہیں فلموں میں کاسٹ کرنے کے لیے مسترد کردیا گیا تھا۔

43 سالہ اداکار و فلم ڈائریکٹر کے مطابق انہیں بتایا گیا کہ وہ جنسی طور پر پرکشش نہیں ہیں، جس وجہ سے انہیں فلموں میں کاسٹ نہیں کیا جاسکتا۔

خیال رہے کہ بریڈلی کوپر نے اداکاری کا آغاز 1999 میں کیا،اب تک وہ 50 کے قریب فلموں،ایک درجن سے زائد ٹی وی سیریلز اور چند تھیٹرز میں بھی اداکاری کے جوہر دکھا چکے ہیں۔

ان کی مشہور فلموں میں ‘ویڈنگ کریشرز، وی ہاٹ امریکن سمر، اولڈر دین امریکا، ییس مین، ویلن ٹائنز ڈے، امریکن ہسل، گارڈن آف گلیکسی، الوہا اور اوینجر انفنٹی وار‘شامل ہیں۔

بریڈلی کوپرنے کامیاب اداکاری کی بدولت متعدد ایوارڈز بھی جیت رکھے ہیں، جب کہ وہ فوربز اور ٹائم میگزین کی 100 متاثر کن شخصیات کی فہرست میں دو دو بار شامل ہو چکے ہیں۔

اگرچہ انہوں نے 4 درجن سے زائد فلموں میں کام کیا،تاہم اب وہ پہلی بار ڈائریکٹر بنے ہیں اور انہوں نے لیڈی گاگا کے ساتھ فلم ‘اے اسٹار از بارن’ کی ہے، جسے رواں ماہ 26 اکتوبر کو ریلیز کیا جائے گا۔

یہ فلم جہاں لیڈی گاگا کی بھی پہلی فلم ہے، وہیں یہ بریڈلی کوپر کی بھی بطور ہدایت کار یہ پہلی فلم ہوگی اور اس فلم کو پہلے سے ہی ایک بہترین فلم قرار دیا جا رہا ہے۔

یہ فلم 1937 میں بننے والی امریکی فلم کا آفیشل ریمیک ہے، اس سے زیادہ حیرانگی کی بات یہ ہے کہ اس کا پہلا ریمیک 1976 میں بنایا گیا تھا، اب اسی فلم کا ریمیک تیسری بار بنایا جا رہا ہے۔

فلم کی کہانی گلوکارہ کی زندگی کے گرد گھومتی ہے، جسے ایک گلوکار سے محبت ہوجاتی ہے۔

گلوکارہ کا کردار لیڈی گاگا جب کہ گلوکار کا کردار خود بریڈلی کوپر نے ادا کیا ہے۔

اپنی فلم کی تشہیر کے سلسلے میں آج کل بریڈلی کوپر میڈیا سے بات کرتے نظر آتے ہیں اور اسی دوران ہی انہوں نے انکشاف کیا کہ انہیں ابتدائی طور پر مسترد کیا گیا تھا۔

نشریاتی ادارے ‘ڈبلیو میگزین’ کو دیے گئے انٹرویو میں بریڈلی کوپر نے انکشاف کیا کہ انہیں کیریئر کے ابتداء میں صرف اس لیے مسترد کیا گیا کہ وہ جنسی طور پر پرکشش نہیں تھے۔

بریڈلی کوپر کے مطابق انہیں بتایا گیا کہ انہیں اسکرین پر دیکھ کر کوئی بھی یہ نہیں کہے گا کہ یہ لڑکا جنسی طور پر بہت ہی زیادہ پرکشش ہے، ساتھ ہی کہا گیا کہ انہیں کیمرے میں دیکھ کر کوئی بھی شخص مائل نہیں ہوگا.

بریڈلی کوپر نے اگرچہ یہ نہیں بتایا کہ انہیں کس ہدایت کار یا پروڈیوسر نے فلم میں کام دینے سے انکار کیا، تاہم انہوں نے بتایا کہ کیمرے کے سامنے جنسی طور پر پرکشش نظر نہ آنے کا جواز بنا کر انہیں مسترد کیا گیا۔

بریڈلی کوپر نے یہ انکشاف ایک ایسے وقت میں کیا ہے جب ان کے ساتھ آنے والی فلم ‘اے اسٹار از بارن’ میں کام کرنے والی اداکارہ لیڈی گاگا نے بھی 3 دن قبل یہ انکشاف کیا تھا کہ انہیں بھی کیریئر کے آغاز میں ناک کی سرجری کرانے کا مشورہ دیا گیا، تاہم انہوں نے اس تجویز کو مسترد کیا۔

دونوں اداکار پہلی بار ایک ساتھ نظر آئیں گے۔

Google Analytics Alternative