Home » 2018 » October » 04 (page 4)

Daily Archives: October 4, 2018

نانا پاٹیکر کے خلاف آوازاٹھانے پر ہندو انتہا پسند جماعت نے دھمکیاں دیں، تنوشری دتہ

ممبئی: بالی ووڈ اداکارہ تنوشری دتہ کا کہنا ہے کہ ناناپاٹیکر پر جنسی ہراسانی کے الزامات لگانے کے بعد ہندو انتہا پسند جماعت ایم این ایس کی جانب سے انہیں دھمکیاں دی گئیں۔

بھارتی میڈیا کے مطابق حال ہی میں دئیے گئے انٹرویو میں اداکارہ تنوشری دتہ نےانکشاف کرتے ہوئے کہاکہ ناناپاٹیکر پر جنسی ہراسانی کے الزامات لگانے کے بعد بھارتی سیاسی جماعت مہاراشٹرا نونرمان سینا(ایم این ایس)کی جانب سے انہیں دھمکیاں دی گئیں اور کہا گیا کہ وہ مجھ پر حملہ کروائیں گے اور مجھے انڈسٹری اور شہر سے باہر نکلوادیں گے

تنوشری دتہ نے الزام لگایا کہ سیاسی جماعت کی جانب سے دی گئی دھمکیوں کے پیچھے نانا پاٹیکر ہی تھے۔ اداکارہ نے کہا کہ انہیں  ایم این ایس کی جانب سے ابھی بھی دھمکیاں دی جارہی ہیں۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے ممبئی پولیس کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے انہیں تحفظ فراہم کرنے کی پیشکش کی۔

متنازعہ بیان پرلیگی رہنما رانا مشہود کی پارٹی رکنیت معطل

اسلام آباد: مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب کا کہنا ہے کہ شہباز شریف نے متنازعہ گفتگو پر رانا مشہود کی پارٹی رکنیت معطل کردی ہے۔

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما رانا مشہود کی متنازعہ بیان پر پارٹی رکنیت معطل کردی گئی ہے۔ ترجمان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگزیب نے تصدیق کرتے ہوئے بتایا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف نے متنازعہ گفتگو پر رانا مشہود کی پارٹی رکنیت معطل کی۔

مریم اورنگزیب کے مطابق رانا مشہود سے باز پرس کے لئے 3 رکنی خصوصی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے، راجہ ظفر الحق، سردار ایاز صادق اور رانا تنویر پر مشتمل کمیٹی تحقیقات کرے گی کہ رانا مشہود نے بیان کیوں اور کس کی ایما پر دیا، تحقیقاتی رپورٹ کی روشنی میں رانا مشہود سے متعلق فیصلہ ہوگا۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز رانا مشہود کا بیان سامنے آیا تھا جس میں ان کا کہنا تھا کہ اب اسٹیبلشمنٹ سے ہمارے معاملات ٹھیک ہوگئے ہیں اور معاملات کو درست کرنے میں شہباز شریف کا بہت بڑا کردار ہے، اسی طرح چلتا رہا تو 2 ماہ کے بعد پنجاب میں (ن) لیگ دوبارہ حکومت بنائے گی۔

ناک کے بیکٹیریا ، جاڑے اور سردی لگنے کا تعین کرتے ہیں

ورجینیا : جاڑا یا سردی لگ جانے کو انگریزی میں صرف ’کولڈ‘ کے لفظ سے بیان کیا جاتا ہے۔ وائرس سے لاحق ہونے والا یہ مرض، کھانسی، بخار، سردی لگنے، حلق میں سوزش اور بہتی ناک کی وجہ بنتا ہے۔ تاہم اب ماہرین نے کہا ہے کہ اس کیفیت کی قسم اور شدت کی وجہ ہمارے ناک میں موجود بیکٹیریا کو قرار دیا جاسکتا ہے۔

نئی تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ جن افراد کے ناک میں اسٹفائلوکوکس بیکٹیریا پایا جاتا ہے اگر انہیں سردی لگ جائے تو وہ بہت شدید ہوتی ہے ۔ اور اگر دوسرے مریض کی ناک میں اسٹفائلوکوکس کی مقدار کم ہوتو ان کا ناک زیادہ متاثر نہیں ہوتا۔ ڈاکٹروں نے ایک دلچسپ بات بھی دریافت کی ہے کہ ناک کے بیکٹیریا چھ مختلف انداز یا پیٹرن میں پائے جاتے ہیں۔

ہر پیٹرن سردی لگنے کی مختلف شدت کا ذمے دار ہوتا ہے۔ یعنی جس انداز سے ناک میں بیکٹیریا ہوں گے اسی طرح سردی یا ٹھنڈ لگنے کا کم یا زیادہ اثر بھی ہوگا۔ ماہرین کے مطابق ناک میں بیکٹیریا کا یہ تناسب جسم کے اندر سردی لگانے والے وائرسوں سے بھی عین مطابقت میں ہوتا ہے۔

یہ تحقیق یونیورسٹی آف ورجینیا اسکول آف میڈیسن کے ماہرین نے کی ہے۔ اس تحقیق کے سربراہ ڈاکٹر رونلڈ بی ٹرنر کہتے ہیں کہ یہ حیرت انگیز تحقیق بتاتی ہے کہ بیکٹیریا کا بوجھ اور اقسام کا تعلق کس طرح جاڑے سے بیمار ہونے کی شدت پر ہوتا ہے۔ اس سے معلوم ہوا کہ ناک کے بیکٹیریا کس طرح ٹھنڈ کے وائرس سے ہمیں بیمار کرتے ہیں۔

واضح رہے کہ ناک کے بیکٹیریا ہمیں ٹھنڈ نہیں لگاتے بلکہ سردی کا وائرس ہمیں بیمار کرتا ہے لیکن ناک کے بیکٹیریا اس شدت کو کم یا زیادہ کرنے میں اپنا کردار ادا کرتے ہیں۔ تاہم اس پر مزید تحقیق لازمی ہے۔

جاپان میں مزدوروں کی کمی دور کرنے کیلیے مستری روبوٹ تیار

ٹوکیو: جاپان میں کم شرح پیدائش اور مزدوروں کی شدید قلت کو دیکھتے ہوئے ایک مزدور روبوٹ تیار کرلیا گیا۔

جاپان نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف ایڈوانسڈ انڈسٹریل سائنس اینڈ ٹیکنالوجی (اے آئی ایس ٹی) کے ماہرین نے بڑی مہارت سے ایک انسان نما مزدور روبوٹ تیار کیا ہے جو تعمیرات کے کام کرسکتا ہے۔ اس سے صاف ظاہر ہے کہ کم ازکم جاپان میں روبوٹ بہت تیزی سے انسانوں کی جگہ لے رہے ہیں۔ اس کی ایک سماجی وجہ یہ بھی ہے کہ جاپان میں روبوٹ بہت پسند اور قبول کیے جاتے ہیں۔

اس نئے روبوٹ کو ’ایچ آر پی فائیو پی‘ کا نام دیا گیا ہے جس میں موٹروں اور ایکچوایٹرز کو بڑھا کر انسانوں کی طرح لچک دار بنایا گیا ہے۔ اگرچہ یہ سست روی سے کام کرتا ہے لیکن اس میں غلطی کا امکان نہ ہونے کے برابر ہے لیکن وقت کے ساتھ ساتھ یہ روبوٹ تیزی سے کام کرنے کے قابل ہوگا تاہم اس سے امکان ضرور پیدا ہوا ہے کہ اگلے چند برس میں روبوٹ مستری عام ہوجائیں گے۔

روبوٹ کی ویڈیو میں اسے ایک تختہ اٹھاتے اور اسے ڈرل مشین کے ذریعے ایک مقام تک لگاتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔ اس طرح یہ بلڈنگ اور دفاتر سازی میں انسانوں کی مدد کرسکتا ہے اور آزادانہ طور پر بھی اپنا کام انجام دے سکتا ہے۔ اس سے قبل ہم کارسازی اور دیگر کارخانوں میں روبوٹس دیکھ چکے ہیں جو اسمبلی لائن پر مختلف کام انجام دیتے نظر آتے ہیں۔

دوسری جانب روبوٹک تھری ڈی پرنٹرز بھی حیرت انگیز کام کررہے ہیں جسے آٹومیشن کا ایک نیا روپ کہا جاسکتا ہے۔ تاہم اے آئی ایس ٹی نے کہا ہے کہ وہ انسانوں کی ضرورت کم سے کم کرتے ہوئے خودمختار روبوٹس سے کام کرانا چاہتے ہیں اس کی وجہ یہ ہے کہ جاپان میں مزدوروں کی کمی ہے لیکن جو مزدور ہیں وہ بہت مہنگے بھی ہیں۔

اس ضمن میں امریکی کمپنی بوسٹن ڈائنامکس نے اٹلس نامی روبوٹ بنایا ہے جو بہت سے کاموں کے ساتھ ساتھ پیٹھ کے بل پلٹ بھی سکتا ہے تاہم اے آئی ایس ٹی کا کہنا ہے کہ وہ روبوٹ سے کم درجے کے کام لینا چاہتے ہیں۔

Google Analytics Alternative