Home » 2018 » November » 01

Daily Archives: November 1, 2018

آسیہ بی بی کیس کا فیصلہ آئین اور قانون کے مطابق ہے ، وزیراعظم

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان  نے کہا ہے کہ آسیہ بی بی فیصلہ آئین اور قانون کے مطابق ہے۔

قوم سے خطاب میں وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ مدینہ کی ریاست کے بعد پاکستان واحد ملک ہے جو اسلام کے نام پر بنا، پاکستان کا کوئی قانون قرآن و سنت کے خلاف نہیں، پاکستان کا آئین قرآن و سنت کے مطابق ہے، سپریم کورٹ کا آسیہ بی بی کیس میں جو فیصلہ آیا ہے وہ آئین اور قانون کے مطابق ہے۔

عمران خان نے کہا کہ واضح کرنا چاہتا ہوں کہ ہماری حکومت ملک کو مدینہ کے طرز کی  فلاحی ریاست بنانا چاہتی ہے، سپریم کورٹ کے فیصلے پر چھوٹے سے طبقے نے ردعمل دیا ہے۔ سپریم کورٹ کے جج کے خلاف جو زبان استعمال کی گئی وہ درست نہیں، فیصلے کے بعد بعض لوگ کہہ رہے ہیں کہ سپریم کورٹ کے ججز واجب القتل ہیں۔ بعض لوگ فوج اور جرنیلوں کو کہہ رہے ہیں کہ آرمی چیف کے خلاف بغاوت کریں۔ سڑکیں بند کی جارہی ہیں۔

وزیراعظم نے کہا کہ سپریم کورٹ سے من پسند فیصلے نہ آنے پر یہ لوگ ملک کو نقصان پہنچارہے ہیں، عوام سے اپیل کرتا ہوں کہ کسی صورت اکسانے والے لوگوں کا ساتھ نہ دیں، یہ کوئی اسلام کی خدمت نہیں کررہے، یہ لوگ جھوٹ بول کر فوج کو آرمی چیف سے بغاوت کا کہہ رہے ہیں اور اپنی سیاست چمکا رہے ہیں۔

وزیر اعظم نے کہا کہ ان عناصر سے بھی کہتا ہوں کہ اپنی سیاست اور ووٹ بینک کے چکر میں ملک کے خلاف کام نہ کریں۔ اگر صورتحال خراب کرنے کی کوشش کی گئی تو ریاست  ایکشن لینے پر مجبور ہوگی، ریاست سے نہ ٹکرائیں۔ ہم کوئی توڑ پھوڑ نہیں ہونے دیں گے، نہ ہی سڑکوں پر ٹریفک رکنے  دیں گے۔

وزیراعظم سے آرمی چیف کی ملاقات، ملک کی موجودہ صورتحال پر تبادلہ خیال

 اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان سے آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ نے ملاقات کی جس میں ملک کی موجودہ سیکیورٹی کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر اپنے ٹوئٹ میں کہا کہ وزیر اعظم عمران خان اور آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے درمیان ملاقات ہوئی، جس میں ملک کی سیکیورٹی صورتحال اور اہم امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

فواد چوہدری نے کہا کہ پاکستان کے امن، سلامتی اور تحفظ کے لئے تمام قوم متحد ہے۔

واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے توہین رسالت کیس میں سزائے موت پانے والی آسیہ بی بی کو رہا کرنے کا حکم دیا ہے جس کے بعد سے ملک کے مختلف شہروں میں دھرنے دیے جارہے ہیں۔

توہین رسالت کیس میں سپریم کورٹ نے آسیہ بی بی کو بری کردیا

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے توہین رسالت کے جرم میں سزائے موت پانے والی آسیہ بی بی کو بری کردیا۔

چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں جسٹس آصف سعید کھوسہ اورجسٹس مظہر عالم میاں خیل پر مشتمل تین رکنی خصوصی بینچ نے  توہین رسالت کیس میں سزائے موت کے خلاف آسیہ بی بی کی اپیل پرمحفوظ فیصلہ سناتے ہوئے آسیہ بی بی کو بری کردیا۔ عدالت نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ آسیہ بی بی کسی اورکیس میں مطلوب نہیں توفوری رہا کیا جائے۔

آسیہ بی بی پرالزام تھا کہ انہوں نے جون 2009 میں ایک خاتون سے جھگڑے کے دوران حضرت محمد ﷺ کی شان میں توہین آمیزجملے استعمال کیے تھے۔

واضح رہے آسیہ بی بی کو توہین رسالت کے الزام میں 2010 میں لاہور کی ماتحت عدالت نے سزائے موت سنائی تھی، لاہور ہائی کورٹ نے بھی آسیہ بی بی کی سزائے موت کے خلاف اپیل خارج کر دی تھی جس کے بعد ملزمہ نے عدالت عظمیٰ میں درخواست دائر کی تھی-

 

حکومت نے پیٹرول کی قیمت میں 5 روپے فی لیٹر اضافہ کردیا

 اسلام آباد: حکومت نے گیس اور بجلی کی قیمتوں میں اضافے کے بعد عوام پر ایک اور پیٹرول بم گراتے ہوئے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کردیا۔

وزارت خزانہ کی جانب سے جاری کردہ اعلامیے کے مطابق پیٹرول کی فی لیٹر قیمت میں 5 روپے اضافہ کیا گیا ہے جس کے بعد نئی قیمت 97 روپے 83 پیسے ہوگئی ہے۔

اسی طرح ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 6 روپے 37 پیسے اضافے کے بعد 112 روپے 94 پیسے فی لیٹرجب کہ مٹی کے تیل کی قیمت 3 روپے اضافے کے بعد 86 روپے 50 پیسے فی لیٹر ہوگئی ہے۔

آصف زرداری کی حکومت کوساتھ مل کرکام کرنے کی پیشکش

اسلام آباد: پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین آصف زرداری نے حکومت کو ساتھ مل کر کام کرنے کی پیشکش کردی۔

قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے آصف زرداری نے کہا کہ ہم حکومت کے ساتھ کام کرنے کو تیارہیں، 5 سال کے دوران ہم حکومت کے ساتھ تعاون کریں گے، میاں صاحب کے ساتھ بھی کام کرنے کو تیارتھے بالکل اسی طرح اس حکومت کے ساتھ بھی تیارہیں لیکن شرط یہ ہے کہ جوکام کا پیمانہ ہووہ صرف انصاف پرمبنی ہو۔

آصف علی زرداری نے کہا کہ ہم ایک دوسرے کو نیچا دکھانے کی کوشش کرتے ہیں، جمہوریت میں کمزوریاں ضرورہیں، سب بیٹھ کرایک حل تجویزکریں جس سے ہم پاکستان کومسائل سے نکال سکیں، اگرہم توجہ نہیں دیں گے تومسائل بڑھتے جائیں گے۔

شریک چیئرمین پیپلزپارٹی نے کہا کہ میں نے سی پیک کا نظریہ سوچا، اگرگوادرپورٹ کونکال دیں تو آگے سی پیک کیا بنتا ہے، پاکستان کی ترقی کا سب سے چھوٹا راستہ سی پیک ہے، ہمیں پاکستان کو مضبوط بنانا ہے لیکن شارٹ ٹرم ٹرانزیشن سے نہیں۔

آصف زرداری نے کہا کہ پانی کا مسئلہ بنیادی طور پر انسانی حقوق کا معاملہ ہے،  کراچی کی آبادی 3  کروڑ ہے، جس میں  ایک کروڑ بہاری، بنگالی اور خیبر پختونخوا سے آنے والے دوست ہیں۔

آصف زرداری نے کہا کہ پیپلزپارٹی کی حکومت آئی تو گندم اور چینی درٕآمد کی جارہی تھی، ہم نے سندھ میں دراوڑ ڈیم بنایا، ایک ایکڑ پر تقریباً ایک لاکھ 24 ہزار گیلن پانی ہر فصل کو دیتے ہیں، اگر اتنا پانی فصل کو دیا جاتا ہے تو کتنا پانی بچایا جاسکتا ہے۔

آسیہ بی بی کی بریت: تحریک لبیک کا ملک کے مختلف شہروں میں احتجاج

آسیہ بی بی کو بری کیے جانے کے خلاف کراچی اور لاہور سمیت ملک کے مختلف شہروں میں تحریک لبیک اور دیگر مذہبی جماعتوں کا احتجاج جاری ہے جب کہ پنجاب اور سندھ کی حکومتوں نے اپنے صوبوں میں دفعہ 144 نافذ کر دی ہے۔

لاہور میں آسیہ بی بی کی بریت کے خلاف تحریک لبیک کے سربراہ خادم حسین رضوی کی قیادت مرکزی دھرنا چیئرنگ کراس پر دیا جارہا ہے جبکہ جماعت اسلامی، جماعت اہلسنت اور سنی تحریک بھی مختلف مقامات پر احتجاج کر رہی ہیں۔

کراچی

کراچی کے مختلف علاقوں میں تحریک لبیک پاکستان کی جانب سے احتجاجی مظاہروں کے باعث لیاری ایکسپریس وے کراچی اور حیدرآباد کے دونوں روٹس کو بند کردیا گیا ہے۔

کراچی میں بلدیہ ٹاؤن چار نمبر، نمائش چورنگی، شارع فیصل اسٹار گیٹ، سہراب گوٹھ الآصف اسکوائر، اورنگی ٹاؤن 5 نمبر، سرجانی ٹاؤن فور کے چورنگی پر احتجاج کیا جارہا ہے۔

احتجاج کے باعث بلدیہ ٹاؤن جانے والی سڑک ٹریفک کے لیےبند ہے اور  شیرشاہ سے بلدیہ جانے والی ٹریفک کولیبراسکوئرکی طرف موڑ دیا گیا ہے جب کہ مواچھ گوٹھ سےآنے والی ٹریفک کو ڈبہ موڑ کی طرف موڑ دیا گیاہے۔

تحریک لبیک کے احتجاج کے سبب ٹاور اور ایم اے جناح روڈ بھی ٹریفک کے لیے بند ہے، جناح برج سے ٹریفک کوآئی آئی چندریگر روڈ کی جانب موڑ دیا گیا ہے، ایم اے جناح روڈ جامع کلاتھ سے ٹریفک کو بابائے اردو چوک کی طرف موڑ دیا گیا۔

ٹریفک پولیس کے مطابق احتجاج کے باعث حیدرآباد سےکراچی آنے  والی ٹریفک کو ابوالحسن اصفہانی روڈ کی جانب موڑ دیا گیا ہے۔

کراچی میں بعض تعلیمی ادارے بند

کراچی میں مختلف مقامات پر احتجاج کے باعث تعلیمی ادارے بند ہونا شروع ہوگئے جہاں جامعہ کراچی، وفاقی اردو یونیورسٹی اور سرسیدیونیوسٹی میں تدریسی عمل معطل ہوگیا۔

اس کے علاوہ شہر بھر میں کالجز، نجی اور سرکاری اسکول بھی بند ہوگئے، شہر میں احتجاج کے باعث پرائیوٹ ٹرانسپورٹ سے گھر جانے والے طلبا کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑا۔

آسیہ بی بی کی بریت کے خلاف مذہبی جماعتوں کی جانب سے ہونے والے احتجاج کے پیش نظر سندھ بھر میں 10 روز کے لیے دفعہ 144 نافذ کردی گئی۔

سندھ میں ڈبل سواری پر پابندی عائد

محکمہ داخلہ سندھ کی جانب سے جاری کیے گئے نوٹیفکیشن کے مطابق سندھ میں 10 روز کے لیے موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد کی جارہی ہے۔

نوٹیفکیشن کے مطابق صوبے میں جلسے، جلوس، ریلیوں اور 4 سے زائد افراد کے اجتماع پر بھی 10 روز کے لیے پابندی ہوگی۔

نوٹیفکیشن کے مطابق سندھ میں اسلحہ لے کر چلنے کے اجازت نامے بھی 10 روز کے لیے منسوخ کردیئے گئے۔

تاہم صحافی، پولیس اہلکار، قانون نافذ کرنے والی ایجنسیوں، سیکیورٹی گارڈز اور رجسٹرڈ پرائیویٹ سیکیورٹی کمپنیوں کے اہلکار اپنی ڈیوٹی کے اوقات کے دوران اس پابندی سے مستثنیٰ ہوں گے۔

لاہور سمیت پنجاب کے مختلف شہروں میں احتجاج

لاہور میں بھی آسیہ بی بی کی بریت کے خلاف تحریک لبیک کے سربراہ خادم حسین رضوی کی قیادت میں چیئرنگ کراس پر احتجاج کیا جارہا ہے۔

اس کے علاوہ ملتان روڈ پر مانگامنڈی میں جماعت اہلسنت کااحتجاج جاری ہے جب کہ چونگی امرسدھو اور داروغہ والا چوک پر بھی سنی تحریک کے کارکنان احتجاج کررہے ہیں۔

ایئرپورٹ پر فلائٹ شیڈول متاثر

لاہور میں راستوں کی بندش سے ایئرپورٹ پرفلائٹ شیڈول بھی متاثر ہوا ہے، بیرون اور اندرون ملک جانے والی پروازیں تاخیر کا شکار ہیں۔

لاہور سے جدہ اور دمام جانے والی پی آئی اے کی پروازوں کا شیڈول متاثر ہوا ہے۔ ایئرپورٹ انتظامیہ کے مطابق مسافروں کے پہنچنے پر پروازیں روانہ ہوں گی، کچھ پروازیں مسافروں کو چھوڑ کر روانہ ہوجائیں گی۔

محکمہ داخلہ نے پنجاب میں دفعہ 144 نافذ کردی

محکمہ محکمہ داخلہ پنجاب نے دفعہ 144کے تحت صوبے بھر میں عوامی اجتماعات پر پابندی عائد کردی ہے جو 31 اکتوبر سے 10 نومبر تک نافذ العمل رہے گی۔

محکمہ داخلہ کے مطابق دفعہ 144 کے تحت دھرنوں، جلسے جلوسوں اورریلیوں پر پابندی ہوگی۔

گوجرانوالہ میں تحریک لبیک کےکارکنان کا چندا قلعہ بائی پاس اور حیدر چوک پر احتجاج جاری ہے جب کہ بورے والا میں لاری اڈہ چوک اور گجرات میں  جی ٹی ایس چوک اور جی ٹی روڈ پر احتجاج کیا جارہا ہے۔

اس کے علاوہ ٹوبہ ٹیک سنگھ کے شہباز چوک اور لیہ میں فتح پور میں احتجاج کیا جارہا ہے۔

جب کہ آزاد کشمیر کے علاقے نکیال میں بھی تحریک لبیک کے کارکنان کی جانب سے آزادی چوک سے میلاد چوک تک احتجاجی ریلی نکالی جارہی ہے۔

میرپور آزاد کشمیر میں تحریک لبیک کے کارکنان چوک شہیداں روڈ پر احتجاج کررہے ہیں۔

اسلام آباد کا فیض آباد انٹرچینج احتجاج کے باعث بند

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں بھی تحریک لبیک کی جانب سے احتجاج کیا جارہا ہے جہاں فیض آباد انٹر چینج احتجاج کے باعث مکمل طور پر بند ہے جب کہ ایکسپریس وے شکریال کے پاس سے اور جی ٹی روڈ گوجرخان سے بند ہے۔

پشاور میں بھی تحریک لبیک کا احتجاج

پشاور میں بھی تحریک لبیک کے کارکنان آسیہ بی بی کی بریت کے خلاف احتجاج کررہے ہیں جہاں رنگ روڈ جمیل چوک پر مظاہرین جمع ہیں جب کہ شباب اہلسنت کے کارکنان پریس کلب کے باہر احتجاج کررہے ہیں۔

مانسہرہ میں اہلسنت والجماعت اور سنی تحریک کی جانب سے ختم نبوت چوک پر احتجاج کیا جارہا ہے اور مظاہرین نے ایبٹ آباد روڈ دھرنا دے کر ٹریفک بلاک کردی۔

موٹر وے اور نیشنل ہائی وے کہاں کہاں بند ہے؟

ترجمان موٹروے پولیس کے مطابق موٹر وے ایم 2 اسلام آباد ٹول پلازہ تمام ٹریفک کے لیے بند ہے جب کہ بالکسر سے اسلام آباد موٹروے پر بھی ٹریفک کا داخلہ بند ہے۔

ترجمان کا کہنا ہے کہ موٹر وے ایم ٹو ٹھوکر نیازبیگ، راوی ٹول پلازہ، کالا شاہ کاکو، کوٹ عبدالمالک اور شیخوپورہ انٹرچینج بھی ٹریفک کیلئے بند ہے۔

اسی طرح قومی شاہراہ یعنی نیشنل ہائی وے ترنول اور ٹیکسلا بجانب پشاور، اکوڑہ خٹک اور پنوعاقل، مندرہ، گوجرخان، سوہاوہ، دینہ، سرائے عالمگیر، کھاریاں، گجرات، چن دا قلعہ، کامونکی، مریدکے، سادھوکی پر بھی ٹریفک بند ہے۔

ترجمان کا کہنا ہے کہ قومی شاہراہ مانگامنڈی، چوہنگ، مراکہ، جمبر، رینالہ خورد، چیچا وطنی، میاں چنوں، ساہیوال اور خانیوال پر بھی ٹریفک بلاک ہے۔

بلوچستان کے حوالے سے ترجمان موٹر وے کا کہنا ہے کہ حب، وندر اور قلات میں بھی قومی شاہراہ پر ٹریفک بند ہے۔

راکھی ساونت کا تنوشری دتا پر 25 پیسے ہتک عزت کا دعویٰ

ممبئی: بالی ووڈ  اداکارہ راکھی ساونت نے تنوشری دتا پر 25 پیسے ہتک عزت کا دعویٰ کردیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق راکھی ساونت نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے تنوشری دتا کے خلاف 25 پیسے کا ہتک عزت کا دعویٰ کیا کہ اور یہ دعویٰ اُن کی اوقات دیکھ کر کیا ہے، میں چاہتی تو 50 کروڑ روپے کا دعویٰ کر سکتی تھی لیکن اُن کے والدین پر ترس آگیا۔

راکھی ساونت نے کہا کہ  تنوشری دتا کے ساتھ جنگ اُس وقت تک جاری رکھوں گی جب تک وہ مجھے عوام کے درمیان میں بدنام کرنا بند نہیں کریں گی جب کہ اُن کا مجھ پر 10 کروڑ کا ہرجانے کا دعویٰ صرف ایک جھوٹ ہے۔ اب تک اُن کی جانب سے کسی عدالت میں درخواست نہیں کی گئی ہے، اگر وہ ایسا کریں گی تو میں بھی عدالتوں کا سامنا کرنے کے لئے تیار ہوں کیوں کہ میں بے گناہ ہوں۔

واضح رہے کہ تنوشری نے راکھی ساونت کی جانب سے ہم جنس پرست ہونے کے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا تھا کہ اس مردانہ انداز کی حامل اور خواتین سے نفرت کرنے والی گندی نالی کو سنبھالنے کے لیے وہ کافی ہیں۔

وزارت داخلہ کے ملک بھر میں سیکیورٹی ہائی الرٹ کرنے کے احکامات

اسلام آباد: آسیہ بی بی کیس کے فیصلے کے بعد احتجاجی مظاہروں کے باعث وزارت داخلہ نے ملک بھر میں سیکیورٹی ہائی الرٹ کرنے کے احکامات جاری کردیئے ہیں۔

وزارت داخلہ میں مظاہرین سے نمٹنے کے لئے اعلیٰ سطحی اجلاس منعقد ہوا جس میں چیف کمشنر، ایس ایس پی آپریشنز، ڈی آئی جی سیکیورٹی اور دیگر اداروں کے حکام نے شرکت کی۔ ذرائع کے مطابق اجلاس میں ملک بھر میں سیکیورٹی ہائی الرٹ کر نے کے احکامات جاری کر دیئے گئے۔

وزارت داخلہ نے وفاق کی طرف سے صوبائی حکومتوں کو راستے کھلوانے کے احکامات جاری کرتے ہوئے کہا کہ شاہراؤں کو کسی صورت بند نہ ہونے دیا جائے اور حساس مقامات کی سیکیورٹی بڑھائی جائے۔

Google Analytics Alternative