Home » 2019 » August » 04

Daily Archives: August 4, 2019

بھارت ایل او سی پر شہری آبادی کو کلسٹر بموں سے نشانہ بنارہا ہے، آئی ایس پی آر

راولپنڈی: بھارت کی جانب سے ایل او سی اور آزاد کشمیر پر بلااشتعال فائرنگ اور گولہ باری میں ممنوعہ کلسٹر بموں کے استعمال کا انکشاف ہوا ہے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق بھارتی فوج لائن آف کنٹرول (ایل او سی) پر شہری آبادی کو کلسٹر بموں سے نشانہ بنارہی ہے، بھارتی فوج نے 30 اور 31 جولائی کو آزاد کشمیر کی وادی نیلم میں توپخانے کے ذریعے کلسٹر ایمونیشن کا استعمال کیا جس کے باعث 4 سالہ بچے سمیت 2 افراد شہید اور 11 شدید زخمی ہوگئے۔ بھارتی فوج کی ایل او سی پر بلااشتعال فائرنگ اور ممنوعہ ہتھیاروں کا استعمال جنیوا کنونشن اور بین الاقوامی انسانی قانون کی خلاف ورزی ہے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق کلسٹر ایمونیشن کا استعمال عالمی قوانین کے تحت ممنوع ہے اور عام شہریوں پر کلسٹر ایمونیشن کے استعمال سے بھارت کا مکروہ چہرہ بے نقاب ہوگیا۔

آئی ایس پی آر نے کہا کہ بین الاقوامی برادری کو بھارت کے جارحانہ اقدام کا نوٹس لینا چاہئے، بھارت کی جانب سے روں سال اب تک 1824 مرتبہ سیز فائر کی خلاف ورزی کی گئی جس سے 17 افراد شہید اور 105 زخمی ہوئے۔

علاوہ ازیں ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے اپنے ٹوئٹر بیان میں بھارتی فورسزکی جانب سے کلسٹربم کا استعمال کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ بھارت کی جانب سے کلسٹربم کااستعمال انٹرنیشنل کنونشن کی خلاف ورزی ہے،کوئی ہتھیار کشمیریوں کو ان کے حق خودارادیت سے پیچھے نہیں ہٹا سکتا،ہر پاکستانی کے خون میں کشمیردوڑتا ہےاور کشمیریوں کی مقامی تحریک آزادی ان شاء اللہ کامیاب ہوگی۔

بھارت کو شہری آبادی پراشتعال انگیزی کا بھرپور جواب دیا جائے گا، پاکستان

 اسلام آباد: ترجمان دفترخارجہ ڈاکٹر محمد فیصل نے کہا ہے کہ بھارت نے شہری آبادی پر کلسٹر بموں کا استعمال کیا جس کا بھرپور جواب دیا جائے گا۔

دفترخارجہ کی جانب سے جاری بیان میں پاکستان نے لائن آف کنٹرول پر بھارتی اشتعال انگیزی پر کی شدید مذمت کی ہے۔ ترجمان دفترخارجہ ڈاکٹر محمد فیصل نے کہا کہ بھارت نے معصوم شہریوں کو نشانہ بنایا اور کلسٹر بموں کا استعمال کیا، بھارتی فوج کی جارحیت انسانی حقوق اور عالمی قوانین کی سنگین خلاف ورزی ہے۔

ترجمان دفترخارجہ نے کہا کہ بھارت ابھی تک 27 فروری بھولا نہیں ہوگا، اور اس نے معصوم شہریوں پرکلسٹرایمونیشن کا استعمال شروع کر دیا ہے، بھارتی اشتعال انگیزی کسی صورت قابل برداشت نہیں، بھارت کو اس کا مناسب اور بھر پور جواب دیا جائے گا۔

دوسری جانب وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ کلسٹر ایمونیشن کا استعمال بین الاقوامی قوانین کے علاوہ  جنیوا کنونشن کی  بھی خلاف ورزی ہے،  اقوام متحدہ  کو بھارت کی سیز فائرمعاہدے کی خلاف ورزی سے متعلق خط لکھا ہے،  اقوام متحدہ  کی ذمہ داری ہے کہ وہ بھارت کی سیز فائر معاہدے کی تسلسل کے ساتھ خلاف ورزی اور مسئلہ کشمیر کوحل کرانے میں کردار ادا کرے۔

شاہ محمودقریشی کا کہنا تھا کہ پاکستان افغانستان سمیت پورے خطے  میں امن واستحکام کے لیے بھرپورتوجہ مرکوز کئے ہوئے ہے اور دنیا پاکستان کی مقبولیت اورامن و استحکام  کی پاکستانی کوششوں اور خواہش کو دیکھ رہی ہے، امریکی صدر بھی مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے ثالثی کا کردار ادا کرنے کو تیار ہیں لیکن بھارت اب بھی مذاکرات کے لیے تیار نہیں، مقبوضہ کشمیر کے حالات  بھارت کے ہاتھ  سے نکل چکے ہیں۔

امریکی صدر کی مسئلہ کشمیرپرپھرثالثی کی پیشکش۔۔۔بھارتی ہٹ دھرمی برقرار

امریکی صدرڈونلڈٹرمپ نے مسئلہ کشمیر پردوبارہ سے ثالثی کی پیشکش کرکے دنیا کو یہ باور کرادیا ہے کہ مسئلہ کشمیر ایک بین الاقوامی سطح کامسئلہ ہے اوراس کاحل ہونا خطے میں قیام امن کے لئے انتہائی ضروری ہے، لیکن بھارتی ہٹ دھرمی بدستور قائم ہے اس نے امریکی ثالثی کونہ صرف مسترد کیا بلکہ مزیداٹھائیس ہزار فوج مقبوضہ کشمیربھیجنے کا فیصلہ کرتے ہوئے وہاں پر مسلمانوں کواقلیت قراردینے کاعندیہ بھی دے دیاہے، ادھرٹرمپ کے مشیرساجدتارڑ نے کہاکہ بھارت بدحواسی کاشکارہوکرمقبوضہ کشمیر میں اضافی فوج بھیج رہاہے جس کا اسے امریکہ اور بین الاقوامی برادری کو جواب دینا ہوگا ۔ نیز صحافیوں سے گفتگوکرتے ہوئے صدرٹرمپ نے کہاکہ وہ وزیراعظم عمران خان اور بھارتی وزیراعظم نریندرمودی سے ملاقات کرچکے ہیں اور ان کے خیال میں دونوں ہی زبردست انسان ہیں ، مجھے لگتا ہے دونوں ایک ساتھ اچھے تعلقات قائم کرسکتے ہیں ،مسئلہ کشمیر سے متعلق امریکی صدر کا کہنا تھا کہ بھارت نے اب تک مسئلہ کشمیر حل کرنے کی پیشکش قبول نہیں کی ہے، یہ مودی پر منحصر ہے جبکہ میں اس حوالے سے پاکستان سے بات کرچکا ہوں ، اگر وہ چاہتے ہیں کہ ان کے درمیان مسئلہ حل کرنے کے لیے مدد کی جائے تو میں ثالثی کا کردار ادا ضرور کرنا چاہوں گا ۔ دوسر ی جانب بھارت نے ایک بار پھر مسئلہ کو کشمیر پاکستان اور بھارت کا معاملہ قرار د یتے ہوئے تیسرے فریق کی مداخلت کو مسترد کردیا، بھارتی وزیر خارجہ جے شنکر نے بنکاک میں آسیان اجلاس کے دوران امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو سے ملاقات کی جس کا حوالہ دیتے ہوئے جے شنکر نے ٹوءٹر پر بیان جاری کیا،بھارتی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ امریکی وزیر خارجہ کو واضح طور پر بتادیا ہے کہ کشمیر پر کسی بھی قسم کی بات چیت صرف پاکستان کے ساتھ ہی کی جائے گی ۔ ادھر وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ بھارت ایل او سی کی خلاف ورزیاں کر رہا ہے اور مقبوضہ کشمیر میں نہتے لوگوں کو شہید کر رہا ہے، اقوام متحدہ کی قرارداد موجود ہے کہ کشمیر متنازع علاقہ ہے، مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق سے متعلق اقوام متحدہ کی رپورٹ بھی سامنے آچکی ہے کہ بھارت خون کی ہولی کھیل رہا ہے ۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی کشمیر پر ثالثی کی پیشکش کے حوالے سے وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ صدر ٹرمپ نے کشمیر پر ثالثی کی بات خطے کے حالات کو سامنے رکھ کر کی ہے، ٹرمپ کی پیشکش پر ان کے شکر گزار ہیں ،پاکستان نے امریکی صدر کی پیشکش پر آمادگی ظاہر کر دی ہے لیکن بھارت کشمیر پر مذاکرات سے کترا رہا ہے،بھارت کہتا ہے کہ مسئلہ کشمیر دو طرفہ معاملہ ہے لیکن بھارت مسئلہ کشمیر پر دوطرفہ نشست کے لیے بھی تیار نہیں ، بھارت مذاکرات کے لئے آسانی سے نہیں مانے گا، بھارت نے صدر ٹرمپ کی گفتگو پر ہی سوالیہ نشانہ کھڑے کر دیئے ہیں ، امریکا کے بھارت کے ساتھ خصوصی تعلقات ہیں اور انہیں مراعات بھی خصوصی دی گئی ہیں ، امریکا بھارت کو سمجھائے اور اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے، مقبوضہ کشمیر میں معاملات بگڑتے جا رہے ہیں ، پاکستان کی یہ خواہش رہی ہے کہ وہ خطے میں امن سے رہنا چاہتاہے اور اس وقت سارا فوکس افغانستان پر ہے، بھارت افغان امن عمل میں رکاوٹیں کھڑی کرتا ہے تو اس سے خطے کا امن متاثر ہو گا ۔ وزیراعظم عمران خان نے منتخب ہونے کے بعد پیغام دیاتھا کہ بھارت ایک قدم بڑھائے ہم دو بڑھائیں گے ۔ اب ضروری ہے کہ امرےکہ اور عالمی طاقتیں تنازعہ کشمےر پر ثالثی مذاکرات شروع کرنے کےلئے بھارت پر دباءو ڈالےں ماضی کے برعکس اس وقت امرےکہ اور بھارت کے درمےان بہت اچھے تعلقات ہےں اور اگر امرےکہ چاہے تو مسئلہ کشمےر کے حل کےلئے بھارت پر اپنا اثرورسوخ استعمال کرسکتا ہے تنازعہ کشمیر کاحل خطے میں امن اوراستحکام کےلئے ناگزیر ہے ،تنازعہ کشمیر بھارتی رویے کی وجہ سے توجہ کامرکز بن گیاہے ۔ امریکی صدرخطے میں امن واستحکام کے حوالے سے انتہائی فکرمند ہیں ۔

افغانستان میں امن عمل۔۔۔پاک امریکہ اتفاق

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے امریکی نمائندہ خصوصی برائے افغان امن عمل زلمے خلیل زاد نے ملاقات کی جس میں افغانستان میں امن عمل کی کامیابی کی کوششوں کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا گیا ۔ پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کی جانب سے جاری بیان کے مطابق ملاقات میں افغان امن عمل کے حوالے سے باہمی متفقہ مقاصد کے حصول پر اتفاق کیا گیا، زلمے خلیل زاد نے افغان امن عمل کیلئے پاکستان کے مخلصانہ تعاون کو سراہا اور توقع ظاہر کی کہ دیگر ممالک بھی افغان امن عمل کے معاملے پر پاکستان کی تقلید کریں گے ۔ ملاقات میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا تھا کہ پاکستان امن کے حصول کیلئے کی جانے والی کوششوں کو تیز کرنے میں اپنا کردار ادا کرے گا ۔ بعد ازاں امریکی سفارتخانے نے زلمے خلیل زاد کے دورہ پاکستان کے حوالے سے ان کی مصروفیات اور ملاقاتوں پر مبنی اعلامیہ جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ زلمے خلیل داد نے دورے کے دوران پاکستانی قیادت کیساتھ افغان امن عمل میں ہونے والی پیشرفت پر تبادلہ خیال کیا،پاکستانی قیادت سے ملاقاتوں میں مثبت پیشرفت اور مستقبل کے اقدامات، افغان مفاہمتی عمل میں پاکستان کے کردار پر بات چیت ہوئی ۔

سپیکرقومی اسمبلی کا ایس کے نیازی کواہم انٹرویو

سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے روز نیوز کے معروف پروگرام ’’سچی بات ‘‘ میں ایس کے نیازی کیساتھ میں گفتگوکرتے ہوئے کہا ہے کہ حاصل بزنجو نے ڈی جی آئی ایس آئی سے متعلق مناسب بات نہیں کی ،پی آئی اے کے ملازمین کے حوالے سے حکومت گولڈن شیک ہینڈ بارے سوچ رہی ہے،جہاں تک تحریک عدم اعتماد میں ہارس ٹریڈنگ کے حوالے سے الزامات عائد کئے جارہے ہیں مجھے اس حوالے سے کوئی ثبوت نہیں ملا ، تمام سینیٹرز نے اپنے ضمیر کے مطابق فیصلہ کیا ہے، چیئرمین سینیٹ قانون کے مطابق کام کررہے ہیں ، میں کہتا ہوں کہ چیئرمین سینیٹ کے کردار اور قانون کے مطابق کام کرنے کی وجہ سے لوگوں نے ان پر اعتماد کیا ہے اگر پارلیمنٹ میں ایسا ماحول بنائیں گے تو لوگوں کا اداروں سے اعتماد اٹھ جائے گا ۔ سوچنے کی بات یہ ہے کہ چیئرمین سینیٹ میں کیا کوتاہی یا کمی تھی ، میرے خیال میں جو کچھ ہوا ہے یہ نہیں ہونا چائیے تھا،سینیٹ ایک مقدس ادارہ ہے،سینیٹ میں تمام صوبوں کی نمائندگی ہے،سینیٹ میں ایسے لوگ ہوتے ہیں جو تھنک ٹینک کے طورپر کام کرتے ہیں ،سینیٹ جیسے ادارے کو بھی اگر متنازعہ بنایا جائے تو یہ ملکی مفاد میں نہیں ۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ چاہتے ہیں کہ امریکہ افغانستان سے نکل آئے،کشمیر مسئلے پر پھر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ میں کشمیر مسئلے پرثالثی کےلئے تیار ہوں ،اس پر پاکستان کو تو کوئی اعتراض نہیں ہے،مگر بھارت بھی تو مانے نا،پروڈکشن آرڈر پرجو بھی قانون کے مطابق ہوگا ضرور کرونگا،انشا اللہ حکومت5سارے پورے کریگی،اس وقت جو بھی حالات ہیں وہ وقتی ہیں انشا اللہ بہتری ہوگی، آگے جتنا بھی وقت آئے گا ترقی اور خوشحالی کا دور ہوگا ۔

جنرل فیض سے توقع ہے اپنے ادارے کو سیاست سے الگ رکھیں گے، بلاول

لاہور: پاکستان پیپلز پارٹی کے چیرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ جنرل فیض حمید سے توقع ہے کہ آئی ایس آئی کو سیاست سے الگ رکھیں گے۔

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیرمین بلاول بھٹو زرداری نے لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سینیٹ ووٹنگ میں کھلے عام دھاندلی ہوئی، پی پی پی کے تمام سینیٹرز نے استعفیٰ دے دیے ہیں لیکن ہم نے اب تک کسی کا استعفی قبول نہیں کیا بلکہ فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی بنائی ہے، جب تک تحقیقات کا عمل مکمل نہیں ہوجاتا میں کسی پر شک نہیں کرسکتا، پی پی پی سینیٹر کو دھمکیاں بھی دی گئیں جبکہ جہانگیر ترین اور گورنر پنجاب چوہدری سرور نے بھی رابطہ کیا تھا۔

حاصل بزنجو کے جنرل فیض پر الزامات سے متعلق سوال کے جواب میں بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ قانون کو توڑنے والوں اور غیر جمہوری طاقتوں کو عدالتی مدد دینے والوں پر سنگین غداری کا آرٹیکل 6 لگتا ہے، یہ آرٹیکل صرف ان لوگوں پر لاگو ہوتا جو آئین کو توڑیں۔

بلاول کا کہنا تھا کہ چیرمین سینیٹ کیخلاف ووٹنگ میں جنرل فیض کی مداخلت کی میرے پاس کوئی خبر نہیں آئی لیکن غیر جمہوری قوتیں اس معاملے میں ملوث تھیں، ماضی میں آئی ایس آئی سیاست میں اور دھاندلی کےلیے استعمال ہوئی ہے، اب وہ چیزیں نہیں ہونی چاہئیں، آئی ایس آئی کے سربراہ جنرل فیض سے بڑی توقعات ہیں کہ اپنے ادارے کو سیاست سے الگ رکھیں گے، متنازع نہیں بننے دیں گے، اور حکومت کے ہاتھوں اپنے ادارے کو استعمال نہیں ہونے دیں گے۔

بھارت کا سیاحوں کو مقبوضہ کشمیر فوری چھوڑنے کا حکم، عوام میں تشویش کی لہر دوڑ گئی

بھارت کی جانب سے سیاحوں اور ہندو زائرین کو مقبوضہ کشمیر فوری چھوڑنے کی ہدایت کے بعد پوری مقبوضہ وادی میں تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے۔

گزشتہ کئی ماہ سے بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر میں آرٹیکل 35 اے اور آرٹیکل 370 کے خاتمے کی باتیں کی جا رہی ہیں۔

مقبوضہ کشمیر میں آرٹیکل 35 اے اور آرٹیکل 370 کے خاتمے کے حوالے سے بھارت کی ہندو انتہا پسند حکمران جماعت بی جے پی کے کئی رہنما بیانات بھی داغ چکے ہیں۔

بھارت کی جانب سے آرٹیکل 35 اے اور آرٹیکل 370 کے خاتمے کی باتوں پر مقبوضہ کشمیر کے سابق وزرائے اعلیٰ فاروق عبداللہ اور محموبہ مفتی سمیت حریت قیادت اور کشمیری عوام شدید تحفظات کا اظہار کر چکے ہیں۔

Mehbooba Mufti

@MehboobaMufti

You failed to win over the love of a single Muslim majority state which rejected division on religious grounds & chose secular India. The gloves are finally off & India has chosen territory over people.

2,982 people are talking about this

چند روز قبل بھارتی وزارت داخلہ نے بغیر کوئی وجہ بتائے مقبوضہ کشمیر میں 10 ہزار اضافی سیکیورٹی اہلکار تعینات کرنے کا اعلان کیا تھا۔

اب بھارت کی جانب سے کشمیر سے سیاحوں اور ہندو زائرین کو فوری طور پر مقبوضہ وادی چھوڑنے کی ہدایت نے کشمیری عوام کی بے چینی میں مزید اضافہ کر دیا ہے

اس کے علاوہ مودی سرکار نے سی پی آر ایف اور دیگر سیکیورٹی فورسز سمیت امریکی ساختہ سی 17 ملٹری ٹرانسپورٹ طیاروں کو بھی الرٹ رہنے کی ہدایت کر دی ہے۔

بھارتی حکومت کی جانب سے کشمیر چھوڑنے کے اعلان کے بعد عوام کی بڑی تعداد کے ائیرپورٹ پہنچنے کے باعث ٹکٹوں کی قلت پیدا ہو گئی ہے۔

بھارتی میڈیا کا اس حوالے سے دعویٰ ہے کہ حکومت نے دہشت گردی کے مبینہ خدشے کے پیش نظر زائرین اور سیاحوں کو کشمیر چھوڑنے کی ہدایت کی ہے جب کہ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق بھارت سرکار کی جانب سے یہ سب کچھ آرٹیکل 35 اے اور آرٹیکل 370 ختم کرنے کے لیے کیا جا رہا ہے۔

کے ایم ایس کے مطابق مقبوضہ بھارتی افواج نے ہفتے کے روز بھی سرچ آپریشن کی آڑ میں دو نہتے نوجوانوں کو شہید کر دیا ہے۔

پیپلزپارٹی اور (ن) لیگ کے اعتماد میں مزید دراڑیں پڑیں گی، خواجہ آصف

لاہور: مسلم لیگ(ن) کے مرکزی رہنما خواجہ آصف نے کہا ہے کہ پیپلزپارٹی اور (ن) لیگ میں عدم اعتماد برقرار ہے اور دونوں جماعت کے اعتماد میں مزید دراڑیں پڑیں گی۔

اینکر منصور علی خان سے گفتگو کرتے ہوئے خواجہ آصف نے کہا کہ بلاول بھٹو زرداری کی افطار پارٹی میں (ن) لیگ کے بڑے وفد کی شرکت پر اعتراض تھا،  اخباری اطلاع ہے کہ چیئرمین سینیٹ کے معاملے پر پوری پیپلزپارٹی نے فیصلہ کیا تھا۔

خواجہ آصف نے پیپلزپارٹی کے سینیٹرز کی جانب سے استعفے جمع کرانے کو ڈرامے بازی قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ سب ڈرامے بازی کے سوا کچھ نہیں، سیاستدان استعفے جمع کرانے کی ڈرامے بازی کرتے رہتے ہیں جیسے دھرنے کے دوران پی ٹی آئی نے استعفے دیے لیکن انہوں نے واپس لے لیے، اب پتہ تب چلے گا جب  پی پی کے سینیٹرز اپنے استعفے سینیٹ میں جمع کرائیں گے۔

خواجہ آصف کا مزید کہنا تھا کہ آصف زرداری پر انویسٹمنٹ ان کی غلطی تھی، پی پی اور (ن) لیگ میں اعتماد کا فقدان برقرار ہے اور دونوں جماعتوں کے اعتماد میں مزید دراڑیں پڑیں گی۔

vچین میں طیاروں کو ’مکمل اسٹیلتھ‘ بنانے والی ’میٹا ممبرین‘ تیار

بیجنگ: چینی ماہرین نے اسٹیلتھ ٹیکنالوجی کے میدان میں انقلابی پیش رفت کرتے ہوئے ایسا اچھوتا مادّہ بنالیا ہے جسے جھلی کی طرح کسی طیارے، ٹینک یا بحری جہاز کی بیرونی سطح پر چڑھا دیا جائے تو وہ ریڈار سے مکمل طور پر اوجھل ہوجائے گا۔

صوبہ سیچوان میں واقع انسٹی ٹیوٹ آف آپٹکس اینڈ الیکٹرونکس میں گزشتہ کئی سال سے اسٹیلتھ ٹیکنالوجی کو جدید تر بنانے پر کام ہورہا ہے۔ اسی سلسلے کی ایک تازہ پیش رفت میں پروفیسر لوو ژیانگانگ اور ان کے ساتھیوں نے ایسا کم خرچ اور ہلکا پھلکا مادہ بنالیا ہے جو ہر قسم کی ریڈار لہریں جذب کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے اور جسے بہت آسانی سے بڑے پیمانے پر تیار بھی کیا جاسکتا ہے۔

ویب سائٹ ’’ساؤتھ چائنا مارننگ پوسٹ‘‘ کے مطابق، اس مادّے پر مشتمل خاص جھلی یعنی ’’میٹا ممبرین‘‘ (meta membrane) کو اگر کسی طیارے، ٹینک یا بحری جہاز پر چڑھا دیا جائے تو وہ کسی بھی طرح کی ریڈار لہریں جذب کرلے گا اور یوں کسی بھی قسم کے ریڈار کی نظروں سے اوجھل رہے گا۔

واضح رہے کہ اب تک طیاروں کو اسٹیلتھ بنانے کے لیے جتنے بھی خصوصی مادّے تیار کیے گئے ہیں، وہ ایک طرف تو بہت مہنگے اور وزنی ہیں تو دوسری جانب وہ ایک محدود فریکوئنسی والی ریڈار لہریں ہی جذب کرسکتے ہیں۔

مثلاً اگر کوئی ریڈار بہت بلند (ہائی) فریکوئنسی پر کام کررہا ہو یا طیاروں پر نظر رکھنے کے لیے بیک وقت کئی طرح کی فریکوئنسی استعمال کررہا ہو تو جدید ترین اسٹیلتھ طیارے پر کی گئی کوٹنگ سے بھی اس ریڈار کی لہریں پلٹ کر واپس آئیں گی اور یوں وہ طیارہ ریڈار (اسٹیلتھ ہونے کے باوجود) اس ریڈار کی اسکرین پر بہ آسانی دکھائی دے جائے گا۔

چینی ماہرین نے جو میٹا ممبرین تیار کی ہے، وہ 0.3 گیگا ہرٹز سے 40 گیگا ہرٹز تک کی ریڈار لہروں کا بیشتر حصہ جذب کرلیتی ہے؛ اور یوں وہ اپنے اندر ملفوف کسی بھی طیارے، ٹینک یا بحری جہاز کو جدید سے جدید ریڈار کی نظروں سے بھی اوجھل کردیتی ہے۔

اس کامیابی کے بعد چینی ماہرین مذکورہ میٹا ممبرین کی زیادہ مقدار میں پیداوار کی تیاری کررہے ہیں جس کے بعد اسے بطورِ خاص لڑاکا طیاروں پر آزمایا جائے تاکہ یہ دیکھا جاسکے کہ یہ ممبرین شدید دباؤ اور درجہ حرارت برداشت کرنے کے قابل بھی ہے یا نہیں۔

بھارت میں 3 مسلمان پاکستان کیلیے جاسوسی کے جھوٹے الزام میں گرفتار

ہریانہ: بھارت میں 3 مسلمان مزدوروں کو پاکستان کے لیے جاسوسی کرنے کے الزام میں حراست میں لے لیا گیا ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق ہریانہ میں بھارتی فوجی کیمپ کے نزدیک ایک کثیر المنزلہ عمارت میں کام کرنے والے 3 مسلمان مزدوروں کو جاسوسی کے الزام میں حراست میں لے لیا گیا ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ 28 سالہ مہتاب، 25 سالہ خالد اور 34 سالہ راغب کے موبائل فون میں فوجی کیمپ کے مختلف حصوں اور فوجی اہلکاروں کی ویڈیو اور تصاویر موجود ہیں جو انہوں نے واٹس ایپ کے ذریعے پاکستان بھیجیں۔

اہل خانہ کا کہنا ہے کہ تینوں دوست مزدوری کے غرض سے ہریانہ میں موجود تھے، پولیس جھوٹے الزامات لگا کر ہم غریب لوگوں کو ڈرا دھمکا رہے ہیں اور اپنے پیاروں سے ملنے نہیں دیا جارہا ہے۔

واضح رہے کہ یہ پہلا موقع نہیں جب جارحیت پسند مودی سرکار کے دور اقتدار میں کسی مسلمان پر جاسوسی کا الزام لگا کر استحصال کیا گیا ہو، بھارتی جیلوں میں اب بھی درجنوں مسلمان ان الزامات پر قید ہیں اور انصاف کے متلاشی ہیں۔

Google Analytics Alternative