Home » 2019 » September » 06

Daily Archives: September 6, 2019

وزیراعظم کا یوم دفاع کے ساتھ یوم یکجہتی کشمیر منانے کا فیصلہ

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے 6 ستمبر کو یوم دفاع کے ساتھ یوم یکجہتی کشمیر منانے کا فیصلہ کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت ترجمان کا اجلاس ہوا جس میں فیصلہ کیا گیا کہ یوم دفاع کے ساتھ یوم یکجہتی  کشمیر منایا جائے گا، اس حوالے سے وزیراعظم نے ہدایت کی کہ کل ملک بھر میں کشمیریوں سے بھرپور اظہاریکجہتی کیا جائے۔

وزیراعظم نے کہا کہ صوبائی دارلحکومتوں میں خصوصی تقریبات منعقد کی جائیں جس میں کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیا جائے جب  کہ پاکستان بھر کے عوام یوم دفاع پر شہداء کے خاندانوں کے پاس پہنچیں۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ وزیراعظم یوم دفاع کشمیری شہداء کے ساتھ منانے کے لیے کل آزاد کشمیر کے صدر مقام مظفرآباد جائیں گے جہاں وزیراعظم کشمیری شہداء کی یاد میں تقریب سے خطاب کریں گے۔

آرمی چیف سے سعودی اور اماراتی وزرائے خارجہ کی ملاقات، مسئلہ کشمیر پر گفتگو

اسلام آباد: آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کے وزرائے خارجہ نے ملاقات کی اور مقبوضہ کشمیر میں بھارتی اقدامات سے پیدا صورتحال سے نمٹنے میں تعاون کی یقین دہانی کرائی۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے سعودی وزیر مملکت برائے خارجہ امور عادل الجبیر اور متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ عبداللہ بن زاید بن سلطان النہیان نے ملاقات کی۔

ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور اور خطے کی سلامتی کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ دونوں وزرائے خارجہ نے علاقائی امن و استحکام کیلئے پاکستان کے کردار کی تعریف بھی کی۔ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا کہ سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کے ساتھ برادرانہ تعلقات باعث فخر ہیں۔

سعودی اور اماراتی وزرائے خارجہ نے یقین دہانی کرائی کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارت کے یکطرفہ اقدامات سے پیدا شدہ صورتحال سے نمٹنے میں تعاون کریں گے۔

سعودی وزیر خارجہ امور عادل الجبیر اور متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ عبداللہ بن زاید بن سلطان النہیان نے گزشتہ روز وزیراعظم عمران خان اور وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے بھی ملاقات کی تھی جس میں مقبوضہ کشمیر کی مخدوش صورتحال اور بھارتی مظالم پر تبادلہ خیال کیا گیا تھا۔

یوٹیلیٹی اسٹورزپربھی دودھ، چائے کی پتی اورمصالحہ جات عوام کی پہنچ سے دور

کراچی: یوٹیلیٹی اسٹورزمیں بھی دودھ، چائے کی پتی اورمصالحہ جات کی قیمتوں میں اضافہ کردیا گیا ہے۔

یوٹیلیٹی اسٹورز پر برانڈڈ دودھ، چائے کی پتی اورمصالحہ جات کی قیمتوں میں اضافہ کردیا گیا ہے۔ جس کے باعث کھلی مارکیٹ کے بعد اب یوٹیلی اسٹورز پر بھی عام استعمال کی اشیا عوام کی پہنچ سے دور ہوتی جارہی ہیں۔

یوٹیلی اسٹورز پر دودھ کا ڈبہ 130 روپے لیٹ رسے بڑھ کر 132 روپے، 475 گرام چائے کی پتی  کا ڈبہ 438 سےبڑھ کر 445 روپے کا ہوگیا۔ اس کے علاوہ  100 گرام ہلدی کا پیکٹ 32 روپے سے بڑھ کر 35 روپے، 200 گرام دھنیا پاؤڈر 13 روپے مہنگا ہوکر 65 روپے سے بڑھ کر 78 روپے ہوگیا۔

اس کے علاوہ 50 گرام دار چینی کا پیکٹ 30 روپے اضافے کے ساتھ 35 روپے سے بڑھ کر 65 روپے جب کہ 200 گرام سفید زیرا 165 روپے سے بڑھ کر 185 روپے کا ہوگیا۔

پاکستان نے ایشیائی پارلیمانی کانفرنس میں بھارتی مظالم کا پردہ چاک کردیا

ایشیائی پارلیمانی کانفرنس میں پاکستان نے بھارتی مظالم کا پر دہ چاک کردیا۔

ایشیائی پارلیمانی کانفرنس میں پاکستان کی جانب سے بیرسٹرسیف نے خطاب شروع کیا تو بھارتی مندوبین تقریر رکوانے کے لیے شور شرابا کرتے رہے تاہم شور شرابے کے باوجود بیرسٹر سیف نے بھارتی مظالم کا پردہ چاک کیا  اور اپنی بات مکمل کی۔

بیرسٹرسیف کا کہنا تھا کہ بھارت انسانی حقوق کےحوالے سے بین الاقوامی قراردادوں کی خلاف ورزی کررہا ہے، پاکستان کے ساتھ تمام معاہدے منسوخ کر دیے گئے ہیں اور کشمیرمیں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں کی جارہی ہیں، کشمیر میں ہزاروں افراد شہید اور ہزاروں لوگ بینائی سےمحروم ہوگئے۔

بیرسٹر سیف نے کہا کہ کشمیرمیں لاکھوں افراد بھارتی افواج کےمظالم برداشت کر رہے ہیں، 5 اگست سے لاکھوں افراد تکلیف میں ہیں، اگر ایشیا میں انسانیت نہیں تو ہم یہاں کیوں بیٹھے ہیں، جب ہم فلسطین اور یہودی تسلط کی بات کریں، تب ہمیں کشمیر میں بھی مظالم کی مذمت کرنی چاہیے، تمام ممبران پارلیمنٹ کشمیرمیں بھارتی جارحیت کی مذمت کرنےمیں ہماری حمایت کریں، امید ہے مقبوضہ کشمیر پر فلسطین اور شام کےوفود میری تائید کریں گے۔

کبھی بھی ڈیل نہیں کروں گا بلکہ قانونی جنگ لڑوں گا، نواز شریف

لاہور: سابق وزیراعظم نواز شریف کا کہنا ہے کہ کبھی بھی ڈیل نہیں کروں گا بلکہ قانونی جنگ لڑوں گا اور ووٹ کو عزت دو کی بات پر قائم ہوں۔

سنٹرل جیل کوٹ لکھپت میں صدر مسلم لیگ (ن) شہباز شریف نے سابق وزیراعظم نواز شریف سے ملاقات کی، شہباز شریف کی 13 اگست کے بعد نواز شریف سے یہ پہلی ملاقات ہے۔ ذرائع کے مطابق ملاقات میں ملکی مجموعی سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا اور ممکنہ ڈیل کی خبروں پر شہباز شریف اور نواز شریف میں مکالمہ بھی ہوا۔

ذرائع کے مطابق سابق وزیراعظم نواز شریف نے کہا کہ میں کبھی بھی ڈیل نہیں کروں گا، قانونی جنگ لڑوں گا، ووٹ کو عزت دو کی بات پر قائم ہوں، موجودہ حکومت جلد اپنے انجام کو پہنچنے والی ہے جب کہ ہمیں این آر او کا طعنہ دینے والے بہت جلد عوام سے این آر او مانگیں گے، عوام عمران خان اور ان کی کابینہ کا احتساب کرے گی۔

ذرائع کے مطابق ملاقات میں نواز شریف نے کہا کہ مسئلہ کشمیر پر دنیا کو جاگنا ہوگا، مقبوضہ کشمیر میں بھارت ظلم کر رہا ہے، دنیا آگے بڑھ کر اس مسئلے کو حل کروائے، اس موقع پر نواز شریف نے شہباز شریف کو مولانا فضل الرحمان کے اسلام آباد کے لاک ڈاون میں بھرپور شرکت کی بھی ہدایت کی ہے۔

کشمیرکیلئے آخری گولی،آخری سپاہی اورآخری سانس تک لڑنے کاعزم

پاک فوج کے ترجمان میجر جنرل آصف غفور نے گزشتہ روز پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ کشمیرہماری شہ رگ ہے اور ہ میں جان سے عزیز ہے، کشمیرکیلئے آخری گولی،آخری سپاہی اورآخری سانس تک لڑیں گے، اس کیلئے کوئی بھی قدم اور کسی بھی انتہا تک جائیں گے خواہ ہ میں کوئی بھی قیمت ادا کرنی پڑے;46;،بھارت میں ہٹلر کے پیروکار فاشسٹ مودی کی حکومت ہے ، وہاں اقلیتیں غیر محفوظ ہیں ،خطہ امن کی جانب بڑھ رہا ہے ، پاکستان امن کا خواہاں مگر بھارت اس وقت نئی جنگ کے بیج بو رہا ہے، پاک فوج کسی بھی حالت میں تیار ہے ، عوام کو فوج پر یقین ہونا چاہئے، بھارت کچھ بھی کر نے سے پہلے 27فروری کو یادرکھے ، پاکستان کی جوہری ہتھیار استعمال کرنے میں پہل نہ کرنے کی کوئی پالیسی نہیں ، ہماری پالیسی ڈیٹرنس (دفاع) کی ہے، اس کیلئے جو بھی اس کا استعمال ہے ریاستی پالیسی کے مطابق ہوگا، ساری کوششیں ناکام ہوجائیں تو جنگ کے سوا کوئی راستہ نہیں بچتا، کشمیر پر سودے بازی ہوئی نہ ہوگی، کشمیر پر ڈیل کیلئے ہماری لاشوں سے گزرنا ہوگا ، اسرائیل کو تسلیم کر نے سے متعلق بات پروپیگنڈا ہے،اسرائیل سے تعلقات کاسوال ہی پیدانہیں ہوتا،اسامہ بن لادن آپریشن میں امریکا نے پاکستان کیساتھ دھوکا کیا، اقتصادی صورتحال خراب ہونے میں ماضی کے غلط فیصلے شامل ہیں ، معیشت کی کیموتھراپی کرنا پڑے گی ،کوئی حکومت یا کوئی ادارہ کشمیر پر سودے بازی کا سوچ بھی نہیں سکتا نہ ہی ایسا کسی کے بس میں ہے، وزیر اعظم عمران خان اور امریکی صدر ڈونلڈٹرمپ کے درمیان جو بات چیت ہوئی وہ کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ، جس زبان اور جس ہتھیار سے بھارت بات کرے گا اس ہتھیار سے جواب دیں گے، قوم کو افواج پاکستان پر مکمل اعتماد کرنا چاہئے ،پاکستانی فوج نے دنیا بھر میں بہترین فوج ہونے کا لوہا منوایا ہے، جنگیں صرف ہتھیاروں اور معیشت سے نہیں بلکہ حب الوطنی جذبہ سے لڑی جاتی ہیں ۔ ہمار ے ایٹمی ہتھیار دفاع کیلئے ہیں ۔ کشمیری عوام کو پیغام دیتے ہوئے کہا کہ پاک فوج جدوجہد آزادی میں کشمیریوں کیساتھ ہے ۔ ہماری سانسیں آپ کیساتھ چلتی ہیں ، 72 سال آپ نے بھارتی دہشت گردی کا مقابلہ کیا، آپ کی جدوجہد آزادی کو دہشت گردی جیسے ناپسندیدہ عمل سے تعبیر کرنے کی کوشش کی گئی ہے ۔ کشمیر بنے گا پاکستان یوم دفاع کی تقریبات کا حصہ ہوگا، آپ کی ثابت قدمی کو سلام ہے، ہ میں آپ کی موجودہ مشکلات کا بھرپور احساس ہے، ہم آپ کیساتھ کھڑے تھے، کھڑے ہیں اور انشا اللہ کھڑے رہیں گے ۔ ہ میں رب سے امید ہے کہ آپ اپنا جائز حق خود ارادیت حاصل کرکے رہیں گے ۔ اگر بھارت پر نظر ڈالیں تو اس وقت وہاں نازی ازم اور آر ایس ایس کی حکومت ہے ۔ بھارت میں بائیس کروڑ مسلمان، سکھ ، دلت اور دوسرے لوگ اس مائنڈ سیٹ کے ظلم وستم کا شکار ہیں ۔ یہ وہی نظریہ ہے جس نے گاندھی کو قتل کیا، جس نے بابری مسجد کو شہید کیا، جس نے گجرات میں مسلمانوں کو شہید کیا ۔ ایسے حالات میں مسلمانوں کو بھارت میں مذہبی اور معاشرتی آزادی نہیں ،بھارتی اقلیتیں مشکلات کا شکار ہیں ، سیکولر بھارت انتہا پسندی کی جانب راغب ہوچکا ہے ۔ پاکستان یوم دفاع کو منفرد انداز میں منا رہا ہے کشمیر بنے گا پاکستان یوم دفاع کی تقریبات کا سلوگن ہو گا، صحافیوں ،اینکرز اور پوری قوم سے درخواست ہے کہ وہ ملک اور قوم کیلئے جانوں کے نذرانے پیش کرنے والے فوجیوں ، رینجرز ، ایف سی ، پولیس اور دیگر اداروں کے شہدا کے گھروں میں جائیں ان کے والدین ، بیوی بچوں اور بہن بھائیوں سے ملا قاتیں کریں اور شہید کی بے مثال قربانیوں پر انہیں خراج تحسین پیش کریں ۔ بھارتی اقدامات خطے کے امن اورسیکیورٹی کیلئے خطرہ ہیں ، عالمی برادری بھارت کو غیرقانونی اقدام روکنے پرزوردے، بھارت کو جارحانہ پالیسیوں سے روکناعالمی برادری کی ذمہ داری ہے، سعودی عرب اوریواے ای کا اس سلسلے میں اہم کردارہے،سعودی عرب کے وزیر مملکت برائے امور خارجہ عادل الجبیر اور متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ شیخ عبداللہ بن زید بن سلطان نے وفود کے ہمراہ وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی سے بھی مشترکہ ملاقات کی ۔ ملاقات کے دوران مقبوضہ جموں و کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں اور خطے میں امن و امان کی مخدوش صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا ۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اپنے سعودی اور اماراتی ہم منصبوں کو مقبوضہ جموں و کشمیر میں کئے گئے بھارت کے یکطرفہ اور غیر قانونی اقدامات اور ان کے مضمرات سے آگاہ کیا ۔ دو دوست ممالک کا پاکستان آنا اور کشمیر کے حوالے سے وزیراعظم سے بات کرنا پاکستان کی کشمیر پر انتہائی کامیاب سفارتکاری کا نتیجہ ہے ۔ بھارت سنگین غلطی پر ہے، اب پاکستان نے دنیا کے سامنے جس طرح کشمیر کا مسئلہ پیش کیا تاریخ میں شاید پہلے کبھی ایسا ہوا ہو، پاکستان کے وزیراعظم سمیت تمام حکام متحرک ہیں ، پاکستانی قوم کشمیریوں کے ساتھ یکجہتی کےلئے وہ کردار ادا کر رہی ہے جو ماضی میں نہیں ہوا، عالمی دنیا بھی کشمیریوں پر ہونے والے بھارتی مظالم کے خلاف آواز اٹھا رہی ہے، کشمیر پر اقوام متحدہ کی قراردادیں موجود ہیں ، اب کشمیر کا مسئلہ اس نہج پر پہنچ گیا ہے کہ بھارت کے ہاتھ پچھتاوے کے سوا کچھ نہیں آئے گا، اب سات دہائیوں سے حل طلب مسئلہ حل ہونے کے قریب ہے، پاک فوج تیار ہے، پاکستانی قوم تیار ہے اور کشمیری بیدار ہیں ۔ ایک لاکھ سے زائد کشمیری مسلمانوں کی شہادت اور طرح طرح کے ظلم وستم خاص طور پر خواتین کی بے حرمتی کے باوجود کشمیر ی حریت پسند بھارت کے ناجائز قبضے کے خلاف ڈٹے ہوئے ہیں ،چھ لاکھ سے زائد بھارتی فوجیوں کے سامنے نہتے کشمیری اپنی جان ومال کی قربانیاں دے کر نئی تاریخ رقم کر رہے ہیں ۔ مسلمان مصیبت میں گھبرایا نہیں کرتے ۔ انشاء اللہ آزادی کشمیریوں کامقصدر بنے گی ۔ بھارت کوشرمندگی اورذلت آمیزشکست کے علاوہ کچھ حاصل نہ ہوگا،جلدبھارت کاشرازہ بکھرتا دکھائی دے رہاہے ۔

ایس کے نیازی کا ایرانی سپریم لیڈرکوخراج تحسین

اورمیڈل دینے کا خوش آئنداعلان

چیف ایڈیٹرپاکستان گروپ آف نیوزپیپرزایس کے نیازی نے پروگرام سچی بات میں ایرانی سپریم لیڈرکومیڈل دینے کا اعلان کیا ہے،سپریم لیڈر;200;یت اللہ خامنہ ای ،ایرانی حکومت،عوام کوخراجِ تحسین پیش کرتے ہوئے کہاکہ ا یران نے مشکل کی گھڑی میں نہتے کشمیریوں کے حق میں ;200;وازبلند کی، انہوں نے کہاکہ اگرحکومتِ پاکستان ایرانی سپریم لیڈرکومیڈل نہیں دیتی توپاکستان میڈیاگروپ دےگا،ایرانی پارلیمنٹ نے کشمیریوں اورپاکستانیوں کے دل جیت لیے ۔ ریڈیو تہران کے ;200;غاسیدمحمدرضوی نے روز نیوز کے پروگرام سچی بات میں اپنی گفتگو میں کہاکہ دنیا میں جہاں بھی مسلمانوں پرمظالم ہوگا ایران مذمت کرےگا، مسئلہ کشمیرصرف کشمیریوں اور پاکستان کا ایشو نہیں ، پوری مسلم امہ کا ایشوہے ،مسلم امہ کی حمایت پرایران نفع نقصان کی پرواہ نہیں کرتا،ایرانی اسمبلی نے متفقہ طورپرمظلوم کشمیریوں کے حق میں قراردادمنظورکی ۔ کشمیر عالم اسلام کا مسئلہ ہے،ایرانی قیادت مسلمانوں کے مفادات کو ترجیح دیتی ہے ۔

کابل میں امریکی سفارتخانے کے قریب دھماکے میں 10 افراد ہلاک، 42 زخمی

کابل: افغانستان کے دارالحکومت کے سخت سیکورٹی والے سفارتی علاقے پی ڈی 9 میں کار بم دھماکا ہوا جس کے نتیجے میں 10 افراد ہلاک اور 42 زخمی ہوگئے۔

افغان حکام کے مطابق خودکش حملہ آور نے امریکی سفارت خانے کے قریب بارود سے بھری گاڑی افغان انٹیلی جنس سروس ’نیشنل ڈائریکٹوریٹ آف سیکورٹی‘ (این ڈی ایس) کی چیک پوسٹ سے ٹکرادی۔

دھماکا اتنا زوردار تھا کہ دور دور تک اس کی آواز سنی گئی، قریبی عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے اور متعدد گاڑیاں تباہ ہوگئیں۔ لاشوں اور زخمیوں کو اسپتال منتقل کیا گیا جہاں متعدد زخمیوں کی حالت تشویش ناک بتائی جاتی ہے جس کے نتیجے میں ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے۔

سوشل میڈیا پر زیر گردش اطلاعات کے مطابق اس حملے میں افغان سیاست دان سلیمان لئیق بھی ہلاک ہوگئے۔

 

طالبان نے حملے کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے کہا ہے کہ حملے میں غیرملکی فوج کے قافلے کو نشانہ بنایا گیا جس میں 12 غیر ملکی اور این ڈی ایس کے 8 اہلکار ہلاک ہوگئے۔

سکھ رکن مسلم خواتین کے خلاف توہین آمیزالفاظ پربرطانوی وزیراعظم پرشدید برہم

لندن: سکھ رکن پارلیمنٹتنمن جیت نے برطانوی وزیراعظم بورس جانسن کی جانب سے گزشتہ سال اخبار “دی ٹیلی گراف” میں مسلم خواتین کے خلاف توہین آمیزالفاظ پرشدید برہمی کا اظہارکرتے ہوئے معافی کا مطالبہ کیا ہے۔

لیبرپارٹی سے تعلق رکھنے والے سکھ قانون سازتنمن جیت سنگھ نے برطانوی پارلیمان میں برطانوی وزیراعظم بورس جانسن کوگزشتہ برس مسلم خواتین کے خلاف توہین آمیز الفاظ “بینک ڈکیت اور لیٹرباکس”پرتنقید کا نشانہ بنانے پراحتجاج کیا اوران سے معافی کا مطالبہ کیا۔

تنمن جیت سنگھ نے پارلیمان میں کہا کہ ہم سکھ میں سے کتنے ہی لوگ ایسے ہیں جواس طرح کے جملے اپنے بچپن سے سن رہے ہیں، ہم با آسانی مسلمان خواتین کے خلاف لکھے گئے تضحیک آمیز جملوں کو محسوس کرسکتے ہیں جو انہیں خود “بینک ڈکیت اور لیٹرباکس” کہنے پرمحسوس ہوا ہوگا۔ تنمن جیت سنگھ نے برطانوی وزیراعظم کوچیلنج کرتے ہوئے کہا کہ وہ پہلے اپنی ہی پارٹی کے اندراسلامو فوبیا کی تحقیقات کا بھی حکم دیں۔

ایوان میں برطانوی وزیراعظم بورس جانسن نے جواب میں کہا کہ ایک سال قبل لکھے گئے کالم کا نقطہ نظربالکل مختلف تھا جسے سیاق وسباق سے ہٹ پر پرکھا جارہا ہے تاہم برطانیہ میں شہریوں کا حق ہے وہ جو مناسب سمجھیں پہنیں۔

واضح رہے کہ برطانوی وزیراعظم نے متنازع کالم میں میں نقاب اور برقع پہننے والی مسلم خواتین کے لیے ’بینک ڈاکو‘ اور ’ ڈاک خانہ ‘ کی اصطلاح استعمال کرتے ہوئے تجویز دی تھی کہ مسلم خواتین نقاب ہٹا کر گفتگو کیا کریں۔

Google Analytics Alternative