Home » Author Archives: Admin (page 10)

Author Archives: Admin

بچوں کو ڈوبنے سے بچانے والا انقلابی کالر

لتھوینیا: دنیا کے بعض حصوں میں ایک سے چار سال تک کے بچوں میں اموات کی بڑی وجہ پانی میں غرقابی ہے اور اسی لیے قیمتی جانوں کو بچانے کی غرض سے ایک انوکھا پلاسٹک کالر بنایا گیا ہے جو پانی میں جاتے ہی گاڑیوں کے ایئر بیگ کی طرح کھل جاتا ہے، انہیں ہوا بھری گیندیں کہنا زیادہ مناسب ہوگا یہ کالر گردن کے چاروں طرف غباروں کی طرح کھل کر بچے کو سطح آب تک لے آتا ہے۔

پاکستان کے مقابلے میں امریکا اور یورپ میں ہر گھر میں نہانے کے ٹب اور سوئمنگ پول ہونے کی وجہ سے بچوں کے ڈوبنے کا خطرہ قدرے زیادہ ہوجاتا ہے اور اسی لیے جدید کالر بنایا گیا ہے جسے ’دی بڈی لائف کالر‘ کا نام دیا گیا ہے۔ اسے لتھووینیا کے ایک انجینئر نے ڈیزائن کیا ہے اور اس کا وزن صرف 120 گرام ہے۔

اگر اسے پہننے کے بعد بچہ پانی میں گرجائے تو عین اسی وقت سینسر تبدیلی کو محسوس کرلیتے ہیں اور صرف تین سیکنڈ میں کالر میں چھپے ایئربیگ کو کھول دیتے ہیں جو بچے کی گردن پانی سے باہر رکھ کر اسے سانس لینے اور دیکھنے میں مدد دیتے ہیں۔ اس کے اندر نمی کو محسوس کرنے والا ایک سینسر بھی نصب ہے۔

اب یہ کالر اسمارٹ میڈک کمپنی کے تحت فروخت کے لیے پیش کردیا گیا ہے اور یقینی طور پر یہ آلہ حادثاتی طور پر پانی میں گرنے والے بچوں کو بچانے میں انتہائی مددگار ثابت ہوگا۔

اصل حقائق

پاکستان کی حکومت اور عوام نے عالمی دہشت گردی کے خاتمے میں جو کردار ادا کیا ہے ، اس کا عشرِ عشیر بھی کسی دوسرے نے نہیں کیا۔ اس بات سے بھلا کون انکار کر سکتا ہے کہ پاک قومی سلامتی کے اداروں نے دہشت گردی کے اس ناسور کو بڑی حد تک ختم کر دیا ہے حالانکہ اس حوالے سے خود پاکستانی قوم اور افواج کو اس ضمن میں جانی اور مالی دونوں لحاظ سے بھاری نقصان اٹھانا پڑا، کیونکہ یہ امر کسی تعارف کا محتاج نہیں کہ ستر سے اسی ہزار کے مابین پاکستانیوں نے اس حوالے سے اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کیا ۔یہ امر اور بھی توجہ کا حامل ہے کہ عالمی دہشتگردی کے خاتمے کی اس جدوجہد میں تقریباً 8 ہزار ان افراد نے بھی اپنی جان جانِ آفرین کے سپردکی جن کا تعلق پاکستان کے قومی سلامتی کے اداروں سے ہے۔پاکستان اور افغانستان کا امن ایک دوسرے سے مشروط ہے ۔ اس ضمن میں قدرے تفصیل سے جائزہ لیتے انسان دوست حلقوں نے رائے ظاہر کی ہے کہ دونوں ممالک تاریخی، ثقافتی اور جغرافیائی، ہر لحاظ سے ایک دوسرے سے ساتھ جڑے ہوئے ہیں اور ان کے برادرانہ روابط تاریخی حوالوں سے بہت مضبوط ہیں۔ البتہ اس بابت سبھی آگاہ ہیں کہ بھارت، امریکہ اور بعض دیگر قوتیں اپنے سطحی مفادات کی خاطر ان دونوں ممالک کے برادرانہ تعلقات میں دراڑ ڈالنے کی ہر ممکن کوشش کرتی آئی ہیں اور یہ سلسلہ ہنوذ پوری شدت سے جاری ہے۔ مگر توقع کی جانی چاہیے کہ پاکستان اور افغانستان کے مخالف اپنی سازش میں کامیاب نہیں ہوں گے۔ یہ امر بھی کسی سے پوشیدہ نہیں کہ پاکستان کی جری افواج نے بیتے چند برسوں میں دہشت گردی کے خاتمے کے حوالے جو شبانہ روز قربانیاں دیں، ان کا معترف ہر ذی شعور ہے۔ ایسے میں ہونا یہ چاہیے تھا کہ پوری عالمی برادری اس امر کا اعتراف کرتی اور وطن عزیز کی قربانیوں کو خاطر خواہ ڈھنگ سے سراہا جاتا مگر عملاً اس کے الٹ ہو رہا ہے اور الٹا پاکستان کو ہی موردِ الزام ٹھہرایا جا رہا ہے۔ یہ امر بھی پیش نظر رہنا چاہیے کہ ٹرمپ، مودی اور این ڈی ایس نے ڈو مور کی گردان کو اپنا دُم چھلا بنا رکھا ہے اور اٹھتے بیٹھتے اسی کا ورد کرتے رہتے ہیں۔ حالانکہ ’’کلبھوشن یادو ‘‘ جیسے دہشتگرد کی گرفتاری کے بعد بھی اگر دہلی اور این ڈی ایس اپنی پارسائی کے دعوے سے باز نہ آئیں تو اسے جنوبی ایشیاء کی بد قسمتی کے علاوہ بھلا دوسرا نام کیا دیا جا سکتا ہے ۔اورآفرین ہے بھارتی حکمرانوں اور این ڈی ایس پر کہ اپنی شرانگیزیوں پر بجائے نادم ہونے کے وہ اپنی چالبازیوں سے باز آنے کا نام ہی نہیں لے رہے۔ ایسے میں اسے عالمی امن کی بد قسمتی ہی قرار دیا جانا چاہیے کہ بھارت،اسرائیل اور کچھ امریکی حلقے تسلسل کے ساتھ وطن عزیز کے خلاف بے بنیاد پراپیگنڈہ کرتے چلے آ رہے ہیں اور یہ سلسلہ رکنے کی بجائے ہر آنے والے دن کے ساتھ دراز سے دراز تر ہوتا چلا جا رہا ہے۔دشمن ان دنوں بھی پاکستان کے خلاف وہ تمام حربے اور چالیں استعمال کر رہا ہے جس کے نتیجے میں ہمارے ملک کی جڑوں کو (خدانخواستہ) کھوکھلا کیا جا سکے اور مذہبی، لسانی، نسلی و جغرافیائی تعصبات کو ابھار کر ایسا ماحول قائم کیا جائے جو ان کے مکروہ عزائم میں معاونت کا سبب بن سکے مگر یہ حقیقت ہے کہ پاک افواج اور قوم نے ہر قدم پر یہ ثابت کیا ہے کہ پاکستان خدا کے فضل سے قائم رہنے کیلئے وجود میں آیا ہے اور ہر آنے والا دن اسے مضبوط سے مضبوط تر بنائے گا اور پاکستان کے ازلی مخالفین اپنی تمام تر ریشہ دوانیوں کے باوجود بالآخر ناکام اور نامراد ہوں گے۔ اس صورتحال کا جائزہ لیتے سنجیدہ مبصرین نے رائے ظاہر کی کہ سبھی جانتے ہیں کہ اصل حقائق اس بھارتی، امریکی اور اسرائیلی پراپیگنڈے سے مختلف ہی نہیں بلکہ قطعاً متضاد ہیں اور اصل حقیقت تو یہ ہے کہ را، این ڈی ایس، موساد اور سی آئی اے پاکستان کے اندر تخریب کاری کو ہر ممکن ڈھنگ سے فروغ دینے کیلئے کوشاں ہیں اور اس ضمن میں ہر وہ حربہ آزمایا جا رہا ہے جس کا تصور بھی کسی مہذب معاشرے میں نہیں ہونا چاہیے۔ مودی سرکار کا جنگی جنون انتہاؤں کو چھو رہا ہے اور امریکہ ہمہ وقت ’’ڈو مور‘‘ کی اپنی راگنی الاپتا رہتا ہے۔ دوسری جانب نہتے کشمیریوں پر ہونے والے مظالم کا سلسلہ بڑھتا ہی چلا جا رہا ہے مگر عالمی برادری کا ضمیر ہے کہ جاگنے کیلئے تیار نہیں۔ امید کی جانی چاہیے کہ پاکستان کے سبھی سماجی ،سیاسی و دیگر طبقات اپنے ذاتی مفادات سے بالاتر ہو کر پاکستان کی نوجوان نسل کیلئے مشعل راہ کا فریضہ سرانجام دیں گے اور آنے والے دنوں میں پاکستان کو ترقی اور خوشحالی کی ان بلندیوں پر پہنچانے کا عزم ضمیم کریں گے جس کا خواب بانی پاکستان اور تحریک پاکستان کے دیگر زعماء نے دیکھا تھا۔ اس ضمن میں میڈیا اور سول سوسائٹی کے سبھی حلقے بھی اپنی ذمہ داریوں کو زیادہ موثر ڈھنگ سے نبھانے کی کوشش کریں گے اور عالمی برادری اپنی وقتی مصلحتوں کو خیرباد کہہ کر اپنا انسانی فریضہ نبھائے گی ۔

حکومت نے چینی کمپنیوں کو سی پیک کے 2منصوبوں کیلئے مزید توسیع دیدی

اسلام آباد: حکومتِ پاکستان نے پاک چین اقتصادی راہداری (سی پیک) سے متعلق 2 منصوبوں میں مالی قابلیت کو پورا کرنے کے لیے چینی کمپنیوں کو مزید توسیع دے دی۔

جن منصوبوں میں حکومت نے چینی سرمایہ کاروں کو توسیع دی ہے ان میں 2 ارب 20 کروڑ ڈالر کے 4 ہزار میگا واٹ والے مٹیاری لاہور ٹرانسمیشن اور 3 سو میگا واٹ کی صلاحیت والے گوادر کول پاور پروجیکٹ شامل ہیں۔

وزیرِ توانائی عمر ایوب خان کی سربراہی میں ہونے ولے پرائیویٹ پاور اور انفرا اسٹرکچر بورڈ (پی پی آئی بی) کا اجلاس ہوا جس میں ایک ارب 70 کروڑ ڈالر کی مالیت کے مٹیار لاہور منصوبے میں چینی کمپنی کو مالی قابلیت پوری کرنے کے لیے 3 ماہ کی توسیع دی گئی ہے جس کی ڈیڈ لائن 28 فروری 2019 ہے۔

واضح رہے کہ چینی سرمایہ کاروں کو اس سے متعلق 6 ماہ کی توسیع رواں برس مارچ میں دی گئی تھی جس کا اختتام یکم دسمبر کو ہوا تھا۔

حکومت کی جانب سے نئی ڈیڈ لائن اس بنیاد پر دی گئی ہے کہ اس کی تکمیل کی تاریخ میں کوئی تبدیلی نہیں کی جائے گی جو 31 مارچ 2021 ہے۔

660 سے زائد کے وی کی ہائی والٹیج ڈائریکٹ کرنٹ کی مٹیاری لاہور ٹرانسمیشن لائن کی اہمیت کو مدِ نظر رکھتے ہوئے بورڈ نے لیٹر آف سپورٹ کے نام پر اس میں توسیع کی منظوری دی۔

وزارت کی جانب سے جاری ہونے والے بیان کے مطابق یہ منصوبہ پاکستان کا پہلا ایچ وی ڈی سی کا منصوبہ ہوگا جبکہ یہ سی پیک کے تحت پہلا نجی منصوبہ بھی ہوگا۔

بیان میں کہا گیا کہ ایسی توسیع سے منصوبے کی تکمیل کی معیاد پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔

خیال رہے پاک مٹیاری لاہور ٹرانسمیشن کمپنی لمیٹڈ کو 878 کلومیٹر طویل لائن بچھانے کے لیے 25 سال کا لائسنس رواں برس دیا گیا تھا۔

مذکورہ کمپنی کے مالک ہانگ کانگ میں موجود زہونگ چینگ شن انٹرنیشنل لمیٹڈ اور زہونگ زو زی انٹرنشنل ہیں، دونوں کمپنیاں بالترتیب 70 اور اور 30 فیصد شیئرز کی مالک ہیں۔

عمران ہاشمی کی فلم ’چیٹ انڈیا‘ کا ٹریلرریلیز

ممبئی: بالی ووڈ اداکارعمران ہاشمی کی فلم ’چیٹ انڈیا‘ کا ٹریلرریلیزہوتے ہی شائقین کی توجہ کا مرکز بن گیا۔

فلم ’جنت‘،’’بادشاہو‘ اور’اظہر‘ جیسی فلموں میں اداکاری کے جوہردکھانے والے اداکار عمران ہاشمی کی اگلی فلم ’چیٹ انڈیا‘ کا انتظار شائقین بے چینی سے کررہے تھے، تاہم اب شائقین کا انتظار ختم ہوا، فلم کا پہلا ٹریلرریلیز کردیا گیا جس میں عمران ہاشمی اپنی پچھلی فلموں سے بالکل مختلف کردار میں نظر آرہے ہیں۔

فلم کی کہانی تعلیمی نظام میں موجود نقل مافیا کے گرد گھومتی ہے جس نے تعلیمی نظام کا بیڑہ غرق کردیا ہے۔ عمران ہاشمی ٹریلر میں نقل مافیا کے سرگرم کارکن کے طور پرنظرآئیں گے۔ فلم کی کہانی سومک سین نے لکھی ہے جب کہ عمران ہاشمی کی پروڈکشن کمپنی ایلپسس انٹرٹینمنٹ نے فلم کو پروڈیوس کیا ہے۔ اس فلم کے ذریعے عمران ہاشمی پروڈکشن کے شعبے میں ڈیبیو کرنے جارہے ہیں۔

فلم میں اپنے کردارکے حوالے سے عمران ہاشمی کا کہنا ہے کہ فلم کی کہانی بے حد جاندارہے، میں نے اپنے کیریئرمیں ایسا کردار پہلے کبھی ادا نہیں کیا۔ فلم ’چیٹ انڈیا‘ اگلے ماہ 25 جنوری 2019 کو نمائش کے لیے پیش کی جائے گی۔

کمبلے کو بھارتی ٹیم کی کوچنگ سے ہٹانے میں کوہلی کا ہاتھ ثابت

نئی دلی: انیل کمبلے کو بھارتی کرکٹ ٹیم کی کوچنگ سے ہٹانے میں کپتان ویرات کوہلی کا ہاتھ ثابت ہوگیا

ایک بی سی سی آئی آفیشل کی جانب سے سپریم کورٹ کی مقرر کردہ کمیٹی آف ایڈمنسٹریٹرز کے سربراہ ونود رائے کو بھیجی گئی ای میل افشا ہوئی ہے، جس میں ان کا کہنا تھا کہ ویرات کوہلی چیف ایگزیکٹیو آفیسر کو باربار ایس ایم ایس بھیج کر کوچ کو تبدیل کرنے کا مطالبہ کررہے ہیں۔

نیب نے سعد رفیق اور سلمان رفیق کو گرفتار کرلیا

لاہور: نیب نے خواجہ سعد رفیق اور ان کے بھائی سلمان رفیق کو گرفتار کرلیا۔

لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس طارق عباسی کی سربراہی میں 2 رکنی بنچ نے سابق وزیر ریلوے سعد رفیق اور ان کے بھائی سلمان رفیق کی ضمانت قبل از گرفتاری میں توسیع کی درخواست پر سماعت کی، اس موقع پر وکیل خواجہ سعد رفیق کا کہنا تھا کہ پیراگون ہاؤسنگ سوسائٹی کا خواجہ برادران کی بے نامی جائیداد ہونے کا الزام غلط ہے، خواجہ برادران کا ایک ایک پیسہ قانونی اور گوشواروں میں ظاہر کیا گیا جب کہ نیب آج تک کوئی اکاؤنٹ یا بے نامی جائیداد کا ثبوت پیش نہیں کرسکا۔

نیب پراسیکیوٹر کی جانب سے عدالت کو بتایا گیا کہ خواجہ برادران کا پیراگون سے تعلق ہے، سعد رفیق کی بیوی نے قیصر امین بٹ سے مل کر پیراگون ہاؤسنگ سٹی میں پارٹنر شپ کی لہذا خواجہ برادران کی درخواست ضمانت خارج کر دی جائے۔

عدالت نے فریقین کے دلائل سننے کے بعد خواجہ برادران کی ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست مسترد کردی جس کے بعد سعد رفیق اور ان کے بھائی سلمان رفیق کو نیب نے کمرہ عدالت سے گرفتار کرلیا۔

دوسری جانب احاطہ عدالت میں مسلم لیگ (ن) کے کارکنوں کی بڑی تعداد موجود تھی، خواجہ سعد رفیق نے احاطہ عدالت میں کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کارکن صبر کا پیمانہ ہاتھ سے نہ چھوڑیں، ہمارا دامن صاف ہے، فیصلے کروانے والے عوام کی آواز کو سن لیں۔

گرفتاری کے بعد خواجہ برادران کو نیب آفس منتقل کردیا گیا ہے جب کہ کل انہیں احتساب عدالت میں پیش کیا جائے گا اور پیراگون ہاؤسنگ سوسائٹی کے حوالے سے تحقیقات کے لیے ریمانڈ کی درخواست کی جائے گی۔

واضح رہے کہ نیب کی جانب سے پیراگون ہاؤسنگ سوسائٹی میں مبینہ فراڈ کے معاملے کی تحقیقات جاری ہے جس پر خواجہ سعد رفیق اور ان کے بھائی سلمان رفیق تفتیش کے لیے نیب لاہور کے سامنے بھی پیش ہوچکے ہیں، خواجہ سعد رفیق اور سلمان رفیق نے گرفتاری سے بچنے کے لیے ضمانت قبل از گرفتاری حاصل کررکھی تھی۔

پاکستان کو ریاستِ مدینہ کے اصولوں پر چلانے کا عہد کر رکھا ہے، وزیراعظم

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ ہم نے عہد کیا ہے کہ پاکستان کو ریاستِ مدینہ کے اصولوں پر چلائیں گے۔

کیڈٹ کالج مستونگ کے طلبا سے بات کرتے ہوئے وزیرِاعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ انسان کی پہچان اس کے ارادوں اور اس کی سوچ سے ہوتی ہے، جو انسان جتنے بڑے چیلنجز قبول کرتا ہے وہ اتنا ہی بڑا انسان ہوتا ہے، ہر چھوٹی کامیابی انسان کو بڑی کامیابیوں کے لیے تیار کرتی ہے، انسان ہارتا اس وقت ہے جب وہ ہار مان لیتا ہے اور جب تک محنت جاری رکھتا ہے بڑا شخص بنتا جاتا ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ 3 طرح کے نظامِ تعلیم نے مسائل کوجنم دیا، ہماری کوشش ہے کہ ملک بھر میں یکساں اور معیاری نصابِ تعلیم رائج کیا جائے، ہم نے عہد کیا ہے کہ پاکستان کو ریاستِ مدینہ کے اصولوں پر چلائیں گے، طالب علموں کے لیے ضروری ہے کہ وہ دنیا کے سب سےعظیم لیڈر ہمارے  پیغمبر حضور اکرمﷺ کی حیاتِ مبارکہ کے بارے میں تعلیم حاصل کریں تاکہ سیرتِ طیبہ سے رہنمائی حاصل کی جا سکے، اس کے لیے حضور اکرمﷺ کی سیرت طیبہ پر تحقیق کے فروغ کے لیے ملک کی 3 بڑی جامعات میں سیرت چیئر قائم کی جا رہی ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ  بلوچستان میں پانی کا مسئلہ بہت سنگین ہے، اس پر قابو پانے کے لیے جامع منصوبہ بندی کی ضرورت ہے، نئے بلدیاتی نظام میں ترقیاتی فنڈز نچلی سطح پر منتقل کیے جائیں گے، ویلیج کی سطح پر ترقیاتی فنڈز کی فراہمی سے بلوچستان کے علاقوں کی پسماندگی دور کرنے میں مدد ملے گی، ملک بھر میں اسپورٹس کا نیا نظام لائیں گے تاکہ نوجوانوں کو کھیل کے میدان میں اپنی صلاحیتیوں کے جوہر دکھانے کے مواقع میسر آئیں۔

سیاسی رہنماؤں کی گرفتاریوں سے حکومت کے عزائم بے نقاب ہو رہے ہیں، آصف زرداری

کراچی: سابق صدر اور پیپلز پارٹی کے شریک چئیرمین آصف زرداری کا کہنا ہے کہ سیاسی رہنماؤں کی گرفتاریوں سے حکومت کے عزائم بے نقاب ہو رہے ہیں۔

مسلم لیگ (ن) کے رہنماؤں خواجہ سعدرفیق اور سلمان رفیق کی گرفتاری پر ردِعمل کا اظہار کرتے ہوئے پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف زرداری کا کہنا تھا کہ انتقامی کارروائیوں سے سیاسی قیادت اور سیاسی پارٹیاں ہرگز کمزور نہیں ہوں گی بلکہ سیاسی رہنماؤں کی گرفتاریوں سے حکومت کے عزائم بے نقاب ہو رہے ہیں۔

آصف زرداری نے کہا کہ پیپلز پارٹی کی خواہش ہے کہ  ہرحکومت اپنی مدت پوری کرے لیکن اپنے مخالفین کو جیلوں میں ڈال کر کوئی بھی حکومت مضبوط اور پائیدار نہیں ہوگی، سلیکٹڈ وزیراعظم نہیں چاہتے کہ پارلیمنٹ مضبوط ہو اور ہر فیصلہ پارلیمنٹ میں ہو۔

Google Analytics Alternative