Home » Author Archives: Admin (page 10)

Author Archives: Admin

کپل شرما سدھو کے دفاع میں میدان میں آگئے

چندھی گڑھ: دی کپل شرما شو کے میزبان کپل شرما پاکستان کی حمایت پر اپنے پروگرام سے نکالے گئے نوجوت سنگھ سدھو کے دفاع میں آگئے۔

چندی گڑھ میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کپل شرما نے نوجوت سدھو کو شو سے نکالنے کو نامناسب قرار دیتے ہوئے کہا کہ سدھو کے ساتھ جو ہوا وہ ٹھیک نہیں ہے، وہ دہشت گردی کے خلاف حکومتی پالیسی کی حمایت کرتے ہیں اور چاہتے ہیں کہ ایسے اقدامات کیے جائیں  کہ پلوامہ حملے جیسے واقعات رونما نہ ہوں تاہم سدھو کو شو سے نکالنا کوئی حل نہیں ہے اور نہ سدھو کے معاملے پر پراپیگنڈا ٹھیک ہے۔ میرا ماننا ہے کہ کسی پر پابندی لگانا اور سدھو کو شوسے باہر کرنا ، یہ معاملات کو حل کرنے کا طریقہ نہیں ہے۔

کپل شرما نے کہا کہ ابھی نوجوت سدھو کی کچھ اور مصروفیات ہیں اس بنا پر وہ فی الوقت ہمارے شو کا حصہ نہیں ہیں البتہ ان کی عدم موجودگی میں ارچنا پورن سنگھ شوکی شوٹنگ میں شامل ہیں۔

واضح رہے کہ بھارتی کرکٹراورسیاستدان نوجوت سنگھ سدھو کی جانب سے پاکستان کی حمایت میں دیئے گئے بیان کے بعد ان کے خلاف محاذ کھلا ہوا ہے اور اسی سلسلے میں انہیں بھارت کے معروف  کامیڈی شو  دی کپل شرما شو سے بھی نکالے جانے اور ان کی جگہ ارچنا کو لانے کی خبریں میڈیا کی زینت بنی ہوئی تھیں۔

فرشتے کو بھی چیئرمین نیب بنا دیں تو کوئی فرق نہیں پڑے گا، بلاول بھٹو

میونخ: چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ فرشتے کو بھی چیئرمین نیب بنا دیں تو کوئی فرق نہیں پڑے گا۔

جرمنی کے شہر میونخ میں میڈیا سے گفتگو میں چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ نیب کا ادارہ سیاسی وفاداریاں بدلنے اور پولٹیکل انجینئرنگ کے لیے بنایا گیا، آپ ایک فرشتہ کو بھی چیئرمین بنادیں تو کوئی فرق نہیں پڑے گا کیوں کہ وہ ادارہ ایسا ہے، وہ سسٹم ایسا ہے کہ وہ سیاسی مخالفین کے خلاف استعمال کیا جاتا ہے۔

بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ نیب کرپشن کے خاتمے کے لیے بنایا گیا، اس قانون کو سیاسی مخالفین کے خلاف استعمال کیا جارہا ہے، کرپشن کے خاتمے کے لیے مفصل قانون ہونا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ یہاں الیکشن تو ہوا ہے لیکن جس قسم کے اعتراضات اٹھائے گئے وہ بھی بہت سنگین ہیں، ہمیں ان ایشوز کا ایڈریس کرنا چاہیے۔

چیرمین پی پی پی کا کہنا تھا کہ فریڈم آف پریس پر حملے ہورہے ہیں، فریڈم آف اسپیچ پر حملے ہورہے ہیں، انسانی حقوق جو سب کے لیے برابر ہونا چاہیے وہ پاکستان میں نہیں ہے۔ بلاول بھٹو زرداری نے بے نامی اکاونٹس کیس میں لارجر بنچ بنانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ مجھے اپنا نقطہ نظر بیان کرنے کا موقع بھی فراہم نہیں کیا گیا۔

ہربھجن سنگھ کا ورلڈ کپ میں پاکستان کے ساتھ میچ کے بائیکاٹ کا مطالبہ

بھارتی کرکٹر ہربھجن سنگھ نے اپنی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ کرکٹ ورلڈ کپ میں پاکستان کے خلاف بھارتی ٹیم کے میچ کا بائیکاٹ کرے۔

فرانسیسی خبررساں ادارے ’ اے ایف پی‘ کے مطابق ہربھجن سنگھ نے کہا کہ ’ 16 جون کو پاکستان کے ساتھ ورلڈ کپ کا میچ نہیں کھیلیں، ملک ہمارے لیے پہلے ہے اور ہم اپنی تمام فورسز کے ساتھ کھڑے ہیں‘۔

انہوں نے کہا کہ ’پاکستان سرحد پار دہشت گردی کو فروغ دے رہا ہے اور یہ حملہ ناقابل یقین حد تک حیران کن تھا‘۔

ہربھجن سنگھ نے 2015 میں اپنا آخری ٹیسٹ کھیلا تھا وہ اب صرف انڈین پریمیئر لیگ کے لیے کھیلتے ہیں،انہوں نے ٹیسٹ میچز میں 417 وکٹیں لی ہیں۔

بھارت اگر مانچسٹر میں کھیلے جانے والے میچ کا بائیکاٹ کرتا ہے تو وہ ورلڈ کپ میں پاکستان کے خلاف کھیلے جانے والے میچ کے پوائنٹس سے محروم ہوجائے گا لیکن ہربھجن سنگھ کا کہنا ہے کہ اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا۔

انہوں نے گزشتہ روز آج تک ہندی نیوز چینل کو بتایا کہ ‘ ہمیں پوائنٹس سے محروم ہونے کی فکر نہیں کیونکہ بھارتی ٹیم اتنی مضبوط ہے کہ وہ پاکستان کے ساتھ میچ کھیلے بغیر بھی جیت سکتی ہے‘۔

کرکٹ کلب آف انڈیا کے سیکریٹری نے پاکستان سے میچ کے بائیکاٹ کا معاملہ آگے پہنچایا ہے۔

سریش بافنا نے پلوامہ حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ’ کرکٹ کلب آف انڈیا ایک اسپورٹس ایسوسی ایشن ہے لیکن قوم سب سے پہلے ہے‘۔

مزید برآں بھارت کی فٹ بال لیگ بھی مشکلات کا شکار ہوگئی ہے کیونکہ دفاعی چیمپئنز منروا پنجاب ایف سی 25 فروری کو رئیل کشمیر کے ساتھ میچ کھیلنے کے لیے سری نگر جانے سے انکار کردیا ہے۔

مشرقی بنگال کی جانب سے بھی 28 فروری کو رئیل کشمیر کے خلاف کھیلےجانے والے میچ پر تشویش کا اظہار کیا گیا ہے۔

رئیل کشمیر کے شریک مالک سندیپ کا کہنا ہے کہ ’وہ میچ نہ کھیلنے کے لیے انتہائی بدقسمت واقعے کو بہانے کے طور پر استعمال کررہے ہیں‘۔

انہوں نے اے ایف پی کو بتایا کہ ’ ہم امن اور کشمیر کے لوگوں کے لیے کھیلنا چاہتے ہیں‘۔

یاد رہے گزشتہ ہفتے بھارت کے زیر تسلط کشمیر کے علاقے پلوامہ میں فوجی دستے پر ہونے والے ایک خود کش حملے میں 41 بھارتی فوجی ہلاک ہوگئے تھے۔

حملے کے بعد بھارت نے روایتی طور پر پاکستان کے خلاف بیان بازی کرتے ہوئے تمام تر ذمہ داری پاکستان پر عائد کی اور ساتھ ہی دھمکیاں دینے کا سلسلہ بھی جاری ہے۔

تاہم پاکستانی وزیر اعظم عمران خان نے نہ صرف اس حملے کی مذمت کی بلکہ بھارت کو پیشکش بھی کی کہ اگر معلومات فراہم کی جائیں گی تو پاکستان تعاون کرنے کے لیے تیار ہے۔

ایمرجنسی نفاذ پر ٹرمپ کے خلاف 16 امریکی ریاستوں نے مقدمہ دائر کردیا

واشنگٹن: امریکا کی 16 ریاستوں نے ملک میں ایمرجنسی نافذ کرنے پر صدر ٹرمپ کے خلاف وفاقی عدالت میں مقدمہ دائر کردیا۔ 

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق 16 ریاستوں نے جنوبی کیلیفورنیا کی وفاقی عدالت میں صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ایمرجنسی نافذ کر کے سرحدی دیوار تعمیر کرنے کے فیصلے کے خلاف حکم امتناعی کے لیے استدعا کردی۔

اس حوالے سے ریاست کیلیفورنیا کے اٹارنی جنرل نے میڈیا کو بتایا کہ 16 امریکی ریاستوں نے عدالت سے صدر ٹرمپ کو ٹیکس ادا کرنے والوں کی رقوم کو ذاتی مرضی اور اپنے مفادات کے حصول کے لیے استعمال کرنے سے روکنے کی درخواست کی ہے۔

درخواست میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ صدر ٹرمپ کی اپنے مقاصد میں کامیابی کی صورت میں مستقبل کے صدور کے لیے مثال قائم ہو جائے گی کہ اور جب بھی کانگریس کثرت رائے سے فنڈز جاری کرنے سے انکار کیا تو صدر ایمرجنسی نافذ کردیا کریں گے۔

واضح رہے کہ میکسیکو کی سرحد پر حفاظتی دیوار کی تعمیر کے لیے درکار فنڈز پر من مانی رقم نہ ملنے پر امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ملک میں ہنگامی حالت نافذ کردی ہے جس کے بعد انہیں کسی بھی کام کے لیے من مانے فنڈز کے اجراء کا اختیار مل گیا ہے۔

پلوامہ واقعہ کے بعد مودی کی دھمکیاں

پلوامہ خود کش حملہ کے بعدجہاں بھارتی حکومت کو کشمیریوں کے ساتھ روا رکھنے جانے والے رویے پر نظر ثانی کی ضرورت ہے وہیں وادی میں موجود اپنی آٹھ لاکھ فوج اور انٹیلی جنس ایجنسیوں کی اصلاح کی بھی ضرورت ہے۔ مگر بھارتی وزیر اعظم نریندرا مودی یہ اہم نکتے نظرانداز کر کے صرف پاکستان کے خلاف ہرزہ سرائی اور دھمکیاں دیتے چلے آرہے ہیں۔ مودی کا دھمکی آمیز لہجے میں کہنا ہے کہہندوستان کی تقسیم کے بعد وجود میں آنے والا ملکدہشت گردوں کی پناہ گاہ اور دہشت گردی کا دوسرا نام بن چکا ہے۔ یہ ملک دیوالیہ ہونے کے دہانے پر ہے اور اس کے منصوبوں کو ہم کسی طور کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔سیکیورٹی فورسزکی یہ قربانی رائیگاں نہیں جائے گی اور اس کے قصوروار چاہے جتنا بھی چھپ جائیں، ان کو اس گناہ کی سزا ضرور ملے گی۔بھارتی سرکار نے ہندوستانی فوج کو اجازت دے دی ہے پلوامہ کے قصورواروں کو کیسے، کہاں، کب، کونسی اور کس طرح کی سزا دی جائے گی؟اس کا تعین ہمارے جوان کریں گے۔ بھارت کے وزیر اعظم نریندر مودی کا کہنا ہے کہ پلوامہ کے حملے کے ساتھ بات چیت کا وقت ختم ہو گیا اور اب دہشت گردی کے خلاف ٹھوس قدم اٹھانے کی ضرورت ہے۔ کارروائی سے ہچکچانہ بھی دہشت گردی کو فروغ دینے کے برابر ہے۔جہاں تک پاکستان کے دہشت گرد ملک ہونے کی بات ہے تویہ ساری دنیا جانتی ہے کہ پاکستان خود کئی عشروں سے دہشت گرد ی کا شکار ملک ہے۔ وطن عزیز میں دہشت گردی کے ہر واقعے کے ڈانڈے براہ راست بھارت، را اور افغانستان میں موجود بھارتی قونصل خانوں سے ملتے ہیں۔ اس کے علاوہ بھارت براہ راست کراچی اور بلوچستان میں مداخلت کا مرتکب بھی پایا گیا ہے۔شاید کلبھوشن یادیو بھارتی حاضر سروس جاسوس کے اقبالی بیا ن بھارتی وزیر اعظم مودی نے پڑھے نہیں۔ اسی کلبھوشن کے خلاف مقدمہ عالمی عدالت انصاف میں آج کل چل رہا ہے جس میں بھارت کلبھوشن کی بیگناہی ثابت کرنے میں کلی طورپر ناکام رہا۔ دوسرا طعنہ پاکستان کے دیوالیہ ہونے کا دیا گیا تو اس ضمن میں عرض ہے کہ پاکستانی معیشت اڑان بھر رہی ہے۔ سی پیک اور حالیہ سعودی ولی عہد کا دورہ پاکستان اور 20 ارب ڈالر کے منصوبے انشاء اللہ پاکستان کو کہا ں سے کہاں پہنچادیں گے۔ دوسری طرف بھارت میں کونسامعاشی استحکام ہے۔ بے روزگاربھارتی جوان حکومت کے خلاف احتجاج کررہے ہیں۔ مودی حکومت کے آنے کے بعد مہنگائی میں اضافہ ہوگیا ہے۔ بھارت میں انتہا پسندی حد سے بڑھ گئی ہے۔ اقلیتوں کے ساتھ ساتھ نچلی ذات کے ہندو بھی عدم تحفظ کا شکار ہیں۔بھارتی وزیر اعظم کی دھمکیوں اور جھوٹی الزام تراشیوں پر وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے سیکرٹری جنرل اقوام متحدہ کو فوری اقدام کیلئے خط لکھ دیا ہے جس میں کہا گیا ہے بھارت تحقیقات کے بغیر پلوامہ حملے کا الزام پاکستان پر لگا رہا ہے۔ حملہ آور کشمیری تھا لیکن الزام پاکستان پر دھر دیا۔ بھارت داخلی مقاصد کے تحت پاکستان دشمن بیانات خطے کا ماحول کشیدہ بنارہا ہے۔بھارت نے جہاں پاکستان پر الزامات کی بوچھاڑ کی اور دھمکیاں دیں وہیں اپنے ملک میں پاکستان اور مسلمانوں کے خلاف اقدامات سے اپنے گھٹیا پن کا ثبوت بھی دیا۔پلوامہ کے بعد مودی سرکار نے پاکستان میں تعینات بھارتی ہائی کمشنر کومشاورت کیلئے واپس بلا لیا تھا اور بھارتی ہائی کمشنر بھارت چلے گئے تھے۔ دوسری طرف پاکستان نے بھی بھارت میں تعینات اپنے ہائی کمشنر سہیل محمود کو واپس بلا لیا ہے ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل کا کہنا ہے کہ پاکستان نے بھارت میں تعینات اپنے ہائی کمشنر سہیل محمود کو مشاورت کیلئے طلب کیا ہے اور وہ نئی دلی چھوڑ چکے ہیں ۔ بھارتیوں کی طرف سے ان ہی بے سرو پا بیانات میں آل انڈیا سنیما ورکرز کے اعلان کا اضافہ ہوگیا ہے۔بھارتی سینما انڈسٹری سے وابستہ فنکاروں اور دیگر تمام عملے پر مشتمل آل انڈیا سِنے ورکرز ایسوسی ایشن نے پلوامہ حملے کے بعد پاکستانی فنکاروں اور اداکاروں پر مکمل طور پر پابندی لگانے کا اعلان کیا ہے۔ایسوسی ایشن کے مطابق پاکستانی فنکاروں کے ساتھ کام کرنے والوں کے خلاف سخت کاروائی کی جائے گی۔ پلوامہ واقعہ کے بعد انتہا پسند ہندوؤں نے پورے بھارت میں مسلمانوں پر حملے کرکے ان کی املاک اور جان کو نقصان پہنچانا شروع کر دیا ہے۔ جموں میں باقاعدہ طور پر گھروں اور گاڑیوں کو نذرآتش کیا گیا جبکہ بھارت کے شہروں میں گھروں اور راہ جاتے مسلمانوں پر حملے کئے جا رہے ہیں۔ جموں میں شہری بھنڈر مکہ مسجد میں پناہ لئے ہوئے ہیں۔ یہاں قریباً دو ہزار افراد موجود ہیں اور مزید پناہ کے لئے آ رہے ہیں۔ ہندوؤں نے اس مسجد کو چاروں طرف سے گھیرا ہوا ہے اور ان کو پولیس کی معاونت حاصل ہے۔بھارت میں تو پہلے بھی کسی نہ کسی عذر کی بنا پر اقلیتوں پر مظالم ڈھائے جاتے ہیں۔ مسلمان اور عیسائی ان کا نشانہ بنتے ہیں اور دلت بھی روندے جاتے ہیں۔ ہندو شدت پسند تعصب کی انتہا پر ہیں اور اپنا قصد پورا کرنے کو پھرتے ہیں۔ افسوس تو اس بات کا ہے کہ اقوام عالم بھی بیدار نہیں ہو پا رہیں۔ ایسے میں بعض بھارتی دانشوروں نے یہ بھی کہا ہے کہ ایسے مظالم سے بھارت میں ایک اور پاکستان کے بیج بوئے جا رہے ہیں کہ قائداعظم محمد علی جناحؒ نے بھی ایسے تعصب ہی کے باعث علیحدہ وطن کا مطالبہ کیا اور پاکستان حاصل کیا تھا۔

*****

سام سنگ کے پہلے ایک ٹی بی اسٹوریج والے فون کی قیمت سامنے آگئی

چند ماہ پہلے یہ لیک سامنے آئی تھی کہ سام سنگ گلیکسی ایس 10 پلس دنیا کا پہلا 12 جی بی ریم اور ایک ٹی بی اسٹوریج والا فون ثابت ہوگا، ابھی کسی اور کمپنی نے ایسی ڈیوائس پیش نہیں کی ہے۔

اس کے بعد اس لیک کی تصدیق ہوتی چلی گئی اور اب جب سام سنگ کے لیے فلیگ شپ فون متعارف کرانے میں 2 دن رہ گئے ہیں، چین میں اس کی قیمت کے حوالے سے لیک سامنے آگئی ہے۔

سام سنگ کا نیا فلیگ شپ فون گلیکسی ایس 10 کم از کم 3 مختلف ورژن میں متعارف کرایا جائے گا اور یہ جنوبی کورین کمپنی کی طاقتور ترین ڈیوائس بھی ہوگی جس کا عندیہ مہینوں سے سامنے آنے والی لیکس اور افواہوں سے ہوتا ہے۔

اور یہ تو واضح ہے کہ 12 جی بی ریم اور ایک ٹی بی اسٹوریج سے لیس فون دوسروں سے بہت زیادہ مہنگا ہوگا۔

اسمارٹ فونز لیکس کے حوالے سے معروف ٹوئٹر صارف ایون بلاس نے گلیکسی ایس 10 پلس کے مختلف ورژن کی قیمتوں کا اسکرین شاٹ ٹوئیٹ کیا ہے جس میں چین میں اس فون کی قیمتوں کو دیا گیا ہے۔

اس ٹوئیٹ کے مطابق 12 جی بی ریم اور ایک ٹی بی اسٹوریج والا فون 10 ہزار چینی یوآن (2 لاکھ 6 ہزار پاکستانی روپے سے زائد) میں فروخت کیا جائے گا جو کہ یورپ کے حوالے سے لیک قیمتوں سے کم ہے۔

ٹوئیٹ کے مطابق 8 جی بی ریم اور 512 جی بی اسٹوریج والا ورژن 9 ہزار یوآن (ایک لاکھ 85 ہزار پاکستانی روپے سے زائد) میں دستیاب ہوگا۔

اس کے مقابلے میں رواں ماہ کے آغاز میں ایک ٹوئٹر صارف نے یورپ میں گلیکسی ایس 10 پلس کے مختلف ورژن کی جو قیمتیں لیک کی تھیں وہ کچھ یوں تھیں 6 جی بی ریم اور 128 جی بی اسٹوریج والا ورژن 999 یورو (ایک لاکھ 58 ہزار پاکستانی روپے سے زائد)، 8 جی بی/ 512 جی بی اسٹوریج 1249 یورو (ایک لاکھ 98 ہزار پاکستانی روپے سے زائد) جبکہ 12 جی بی/ ایک ٹی بی اسٹوریج والا فون 1499 یورو (2 لاکھ 37 ہزار پاکستانی روپے سے زائد) میں فروخت کیا جائے گا۔

پاکستان میں اس فون کی قیمت کیا ہوگی کچھ کہنا مشکل ہے کیونکہ یہاں عام طور فلیگ شپ فون دیگر مارکیٹوں کے مقابلے میں کچھ مہنگے ہی ہوتے ہیں۔

خیال رہے کہ سام سنگ 20 فروری کو سان فرانسسکو میں ایک ایونٹ کے دوران اپنے فلیگ شپ سیریز کے فونز کو متعارف کرائے گی جو کہ صارفین کو 8 مارچ تک دستیاب ہوگا۔

بھارتی فضائیہ کے 2 طیارے مشق کے دوران آپس میں ٹکرا کر تباہ

نئی دہلی: بھارت کے شہر بنگلورو میں 2 بھارتی طیارے ایئر شو کے لیے ریہرسل کے دوران آپس میں ٹکرا کر تباہ ہوگئے۔

بھارتی خبر رساں ایجنسی  اے این آئی کے مطابق بنگلورو کے یکلاہنکا ایئربیس میں منعقدہ ایئر شو ‘ایرو انڈیا 2019’ کی ریہرسل جاری تھی کہ اس دوران 2 طیارے آپس میں ٹکرا گئے اور یکلاہنکا بیس پر ہی گِر کر تباہ ہوگئے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق حادثے سے قبل دونوں طیاروں سے پائلٹ باہر نکلنے میں کامیاب رہے اور کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق حادثے کی وجہ جاننے کے لیے تحقیقات شروع کردی گئی ہیں۔

چین کا ناقابل یقین اور دنگ کردینے والا منصوبہ

چین ایک ایسے ملک کے طور پر ابھر رہا ہے جس کے منصوبے ناقابل یقین ہوتے جارہے ہیں لیکن وہ انہیں حقیقت کا روپ دینے میں کی کوششوں میں مصروف ہے۔

اور چین اپنی توانائی کی ضروریات پوری کرنے کے لیے سورج کا سہارا لینے کا ارادہ رکھتا ہے مگر اس میں انفرادیت یہ ہے کہ وہ بالائی خلا میں پاور اسٹیشن تعمیر کرنے جارہا ہے۔

یہ بجلی گھر یا پاور اسٹیشن زمین کے مدار میں ہوگا اور سورج کی شعاعوں کو بجلی میں بدل کر یہ توانائی واپس زمین پر بیم کی شکل منتقل کرے گا۔

چین کو توقع ہے کہ اگر چینی اسپیس ایجنسی اس کے لیے درکار ٹیکنالوجی تیار کرنے میں کامیاب ہوئی تو اس منصوبے کو 2030 تک مکمل کرلیا جائے گا اور اس کی بدولت ہر وقت بجلی کی سپلائی جاری رکھنے میں مدد ملے گی۔

اس ٹیکنالوجی کی آزمائش 2021 سے 2025 کے درمیان کیے جانے کا امکان ہے جس کے بعد ایک میگاواٹ سولر پاور اسٹیشن 2030 تک خلا میں بھیجے جائے گا۔

اس منصوبے کے تحت مستقبل میں زیادہ بڑے اور موثر پاور اسٹیشنز کو بھی خلا میں منتقل کیا جائے گا۔

اس حوالے سے تجرباتی بیس کو چین کے شہر چونگ چنگ میں تیار کرلیا گیا ہے۔

چین کا یہ مجوزہ پاور اسٹیشن 36 ہزار کلومیٹر بلندی پر زمین کی مدار میں موجود ہوگا، جس سے پہلے چینی سائنسدان چھوٹے پاور اسٹیشن تعمیر کرکے خلا میں بھیجیں گے۔

چینی سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ اس منصوبے سے 99 فیصد تک بجلی کی فراہمی وقت پر ہوگی جبکہ یہ ماحول دوست بھی ہوگی۔

اس منصوبے کے تحت سولر انرجی کو خلا میں پہلے بجلی میں منتقل کیا جائے گا جس کے بعد مائیکرو ویو یا لیزر کی شکل میں زمین پر بیم کیا جائے گا جہاں گرڈ اسٹیشن اسے موصول کرے گا۔

سائنس فکشن ناول جیسا یہ منصوبہ نیا نہیں، جاپان اس بارے میں ایک دہائی قبل بات کرچکا ہے جبکہ امریکا میں بھی گزشتہ سال اس طرح کے منصوبے پر بات کی گئی۔

چین اس وقت خلائی منصوبوں پر امریکا کے بعد سب سے زیادہ فنڈز خرچ کرنے والا ملک ہے اور اس مقصد کے لیے اس نے 8 ارب ڈالرز سالانہ بجٹ مختص کیا ہوا ہے تاکہ اس معاملے میں روس اور امریکا کو پیچھے چھوڑا جاسکے۔

چین دنیا کا پہلا ملک بننا چاہتا ہے جو چاند پر ایک بیس قائم کرنے میں کامیاب ہوگا اور اس کے لیے وہ تھری ڈی پرنٹنگ ٹیکنالوجی کی مدد لے گا۔

Google Analytics Alternative