Home » Author Archives: Admin (page 4)

Author Archives: Admin

مقبوضہ مغربی کنارے میں اسرائیلی فوج کی کارروائی، 3 فلسطینی شہید

مقبوضہ بیت القدس: اسرائیلی فوج نے مقبوضہ مغربی کنارے کے مختلف علاقوں میں محاصرے اور گھر گھر تلاشی کے دوران فائرنگ کر کے 3 فلسطینیوں کو شہید کردیا۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق اسرائیلی فوج نے مقبوضہ بیت المقدس اور مغربی کنارے کے مختلف علاقوں میں چھ گھنٹے طویل محاصرے کی ایک کارروائی کے دوران تین فلسطینیوں کو فائرنگ کرکے شہید کردیا۔

آپریشن میں 3 فلسطینیوں کی شہادت کے بعد جمعرات کے روز مقبوضہ مغربی کنارے  میں غیر قانونی آباد کاری والے علاقے میں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے 2 اسرائیلی ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے۔

صیہونی فوج نے واقعے کا الزام فلسطینیوں پر عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ کار میں سوار فلسطینی حملہ آوروں نے بس اسٹاپ کے قریب گولیاں چلائیں جس سے 2 شہری ہلاک ہوئے ۔

مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی جارحیت سے مزید 2 کشمیری شہید

سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی فوج کی فائرنگ سے مزید 2 کشمیری شہید ہوگئے۔

کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق مقبوضہ کشمیرکے علاقے سوپورمیں بھارتی فوج نے ایک بار پھربربریت کا مظاہرہ کرتے ہوئے 2 کشمیریوں کو شہید کردیا۔ بھارتی فوج کی جانب سے محاصرے کے دوران کشمیری نوجوانوں کوشہید کیا گیا۔

محاصرے کے بعد کٹھ پتلی انتظامیہ کی جانب سے وادی کے مختلف علاقوں میں انٹرنیٹ سروس معطل کردی گئی ہے جب کہ حریت رہنماؤں کی کال پرشہادتوں کے خلاف وادی بھرمیں مکمل ہڑتال جاری ہے۔

مذہبی آزادی کا بہانہ۔ امریکہ نے پاکستان کو بلیک لسٹ کر دیا

عیسائیوں نے مسلمانوں پر اپنی شیطانی تہذیب کو مسلط کرنے کے لیے مختلف طریقے اور قانون بنا رکھے ہیں۔ اس سے قبل اسی قانون کے تحت امریکا، مسلمان ملک سعودی عرب،ایران ا ور سوڈان کوبلیک لسٹ میں شامل کر چکا ہے۔ ہم، اِس سے قبل کئی بار قرآن کی آیات کی طرف حکمرانوں کو متوجہ کرتے آئے ہیں کہ قرآن میں ہے کہ یہودو نصارامسلمانوں کے کبھی بھی دوست نہیں ہو سکتے جب تک مسلمان ان جیسے نہ ہوجائیں۔یعنی ان کی تہذیب اختیا نہ ر کر لیں۔ہم اس وقت طرف پاکستان کی امریکی کے ساتھ نام نہاد دوستی کا ذکر ہیں۔امریکا نے دوستی کی آڑ میں پشاور کے بڈھ بیر کے ہوئی اڈے ے اپنا جاسوس جہاز، روس کی سرزمین تک اُڑیا۔جسے روس نے مار گرایا تھا۔ اسی وجہ سے روس پاکستان کا مخالف ہو ا اور اس کا بدلہ، روس نے مشرقی پاکستان توڑنے میں اپنی ایٹمی گن بوٹس سے بھارت کی مدد کی تھی۔۱۹۶۵ء کی بھارت پاکستان جنگ میں امریکا سے خریدے گئے اسلحہ کے پرزے پاکستان کودینا روک دیے تھے۔ ایف سولہ جہازوں کی پیشکی قیمت ادا کرنے کے باوجود جہاز نہیں دیے۔بلکہ سوابین تیل دیا تھا۔بعد میں افغان جنگ کے وقت کچھ جہاز دیے تھے۔مشرقی پاکستان پر بھارت کے حملے پر بھی کہا تھا کہ چھٹابہری بیڑا پاکستان کی مدد کی لیے چل پڑھا ہے۔چھٹا بہری بیڑا مشرقی پاکستان پر بھارت کے قبضے تک نہیں آیا۔ ہاں اُس وقت کی امریکی وزیر خارجہ ہنری کیسنجر نے اپ نے کتاب میں لکھا ہے کہ مشرقی پاکستان توڑنے میں امریکا بھی ہاتھ تھا۔اب امریکا پاکستان کے خلاف بھارت اوع افغانستان کو استعمال کر رہا ہے جس کیوجہ سے پاکستان میں دہشت گردی عروج پر رہی۔امریکا اور مغرب کو اسلامی اور ایٹمی پاکستان ہرگز گوارا نہیں۔ امریکا کو یاد رکھنا چاہیے کہ پاکستان نے سویت یونین کو افغانستان میں شکست دینے میں امریکا کی مدد کی تھی۔اس طرح امریکا کو یک قطبی لیڈر بنانے میں پاکستان کا کردار تھا۔ ویسے تو پاکستان بننے کے وقت بھارت کے ظلم و زیادتی کے خوف سے بچنے کے لیے حکومت پاکستان نے امریکا سے دوستی کرنی مجبور تھی۔اصل میں جو مسلمانوں ملک برطانیہ سے آزادہوئے تھے انہیں امریکا کے حوالے کرنا شرع کیا تھا تاکہ مستقل غلام بنے رہیں۔ اس کے پیچھے وہی حکمت عملی تھی کہ مسلمانوں کی کی کمزوریوں سے فائدہ اُٹھاتے ہوئے ان پر اپنے تہذیب مسلط کر دی جائے۔ مسلمانوں نے اپنی دور میں روما کی سلطنت کو شکست دی تھی یہ اسی کا بدلہ لینا تھا۔جب مسلمانوں کی خلافت عثمانیہ کو پہلی جنگ عظیم کے بعد ختم کیا گیا تھا تو صلیبیوں نے عثمانی سلطنت کو کئی راجوڑوں میں تقسیم کیا تھا ۔اپنے پھٹو مسلمان حکمران عام مسلمانوں پر مسلط کیے تھے ۔ آج تک اسلامی ملکوں نے امریکا سے اپنی جان نہیں چھڑائی، جس میں پاکستان بھی شامل ہے۔ شاعر اسلام علامہ اقبالؒ نے اپنے اشعار کے ذریعے برصغیر کے مسلمانوں اور امت مسلمہ کو اس بات سے بار بار خبردار کیا۔ مگر علماء سو نے علامہ اقبال ؒ پر کفر کے فتوے لگائے اور حکمرانوں نے ان کی بات بھی نہیں سنی۔ بلکہ اب تو پاکستان میں تعلیمی نصاب میں سے علامہ اقبالؒ کے کلام تک کو نکالا جا رہاہے۔ علامہ اقبالؒ کی سالانہ چھٹی تک کو ختم کر دیا۔امریکی فنڈڈ پاکستانی الیکٹرنک میڈیا نے علامہ اقبال ؒ کے خلاف پروگرام کیے۔ قاعد اعظم ؒ کو سیکولر ثابت کرنیکی ایک مہم چلائی ہوئی ہے۔ ملک میں کئی ویب سائٹس پرقائد اعظمؒ کے اسلامی وژن اور دو قومی نظریہ کی نفی کی جاتی ہے۔ بات شروع ہوئی تھی کہ امریکا نے پاکستان کو بلیک لسٹ میں شامل کر لیا ہے۔ بلکہ اس سے قبل پاکستان کے خلاف صلیبی ایک اور بھی سازش کر چکے ہیں۔برطانیہ اور امریکا نے یہود کی شہ پر پاکستان میں مسلمانوں میں تفرقہ ڈالنے اور مسلمانوں میں سے جہاد ختم کرنے کے لیے مرزا غلام احمد قادیانی کو ایک جعلی نبی بنوا کو پاکستان میں لگایاتھا۔ اس نے برطانیہ کی ملکہ کو ایک خط کے ذریعے لکھا۔میں نے اپنے کتابوں میں نے آپ کی خواہش کے مطابق وسیع کام کیا ہے۔ مسلمانوں میں سے جہاد کے فلسفہ کو ختم کر دیا ہے۔ جہاد مخالف کتابوں سے برصغیر کی لابریئریاں بھر گئیں ہیں۔جب سے مرزا قیادیانی نے نبی ہونے کادعوی ٰ کیا تھا۔ علماء حق نے بھی قوت سے مرزا غلام احمد قادیانی کا کیا تھا۔ اس پر مولانا موددیؒ اور عبدالستار نیازی کو موت کی سزا بھی عدالت نے سنائی تھی۔ علماء نے بڑی کوششیں کر کے ۱۹۷۴ء میں ذوالفقار علی بھٹو صاحب کے دور میں قادیانوں کو جمہوری طریقے سے پاکستان کی پارلیمنٹ میں بحث مباثے کے بعد اسلام سے خارج کر دیا گیا تھا۔ مراز کاذب نبی نے لکھا کہ جو اس کو نبی نہیں مانتا وہ کافر ہے۔ یعنی ڈیڑھ عرب مسلمان کافر ہو گئے اور صرف مرزاکو نبی ماننے والے قایادنی مسلمان ہیں۔پاکستان کی پارلیمنٹ میں قادیانیوں کو پورا موقعہ فراہم کیا تھا ۔ شاید اس نیک اور تاریخی واقعہ جس میں بھٹو نے امت مسلمہ کی جان چھڑائی، اللہ محروم بھٹو صاحب کی غلطیاں معاف فرما کر جنت میں داخل کردے۔ امریکا اُسی ہی روز پاکستان کے آئین سے اس شک کو ختم کرانے کی کوششیں کرتا رہتا ہے۔کبھی آئی ایم ایف ے قرضہ لینے کے موقعہ پر یہ شرط ڈلواتا رہتا ہے۔ دوسری طرف آج تک قادیانیوں نے پاکستان کے آئین کو نہیں مانا، بلکہ اس کی مخالفت کرتے ہیں۔ قادیانی عام مسلمانوں کو دھوکا دیتے ہیں اور کہتے ہیں کہ ہم مسلمانوں کے شیعہ ،سنی، دیوبندی اور اہل حدیثوں کی طرح ایک فرقہ ہیں ۔جب کہ پاکستان کے آئین نے ان کو مسلمانوں کا ایک فرقہ نہیں بلکہ غیر مسلم قرار دیا۔ جب تک قادیانی اپنے آپ کو اقلیت نہیں مانتے اُس وقت تک پاکستان کے آئین کے باغی ہیں۔ان کو اقلیتوں کے بھی حقوق حاصل نہیں ہونے چاہییں۔ پاکستان میں اقلیتوں کو شہری ہونے کے ناتے پورے حقوق حاصل ہیں جبکہ قادیانی آئین پاکستان کے باغی ہیں۔ کیا دنیا میں کسی کو اس ملک، جس میں وہ رہتا ہے کہ قانون و آئین کا پابند نہیں ہونا چاہیے۔ کیا مسلمان جن مغربی ملکوں رہتے ہیں ان ملکوں کے آئین و قانون کی مخالفت کر کے ان ممالک میں رہ سکتے ہیں؟ پاکستان میں ہندو سکھ پاکستان کے آئین کو مان کر رہی رہ رہے ہیں۔ حکومت نے سکھوں کے متبرک شہر کے لیے اپنی سرحد کھولی دے ہے۔ جس سے پاکستان کی سکھ اقلیت نے خوشی کا جشن منایا۔ اس لیے امریکا کو چاہیے کہ بین لاقوامی قانون کی پابندی کرے اور دھونس دھاندلی کی پالیسی سے رجوع کرے۔اپنے قادیانی ساتھیوں اس بات پر قائل کرے کہ وہ پاکستان کے آئیں قانون تسلیم کروپھر میں تمہاری مدد کرنے کا حق بجانب ہو سکتا ہوں۔حکومت نے امریکی الزام کو مسترد کر کے امریکی سفارت کو دفتر خارجہ طلب کر شدید احتجاج کیا ہے۔ شرین مزاری صاحبہ اپنا رد عمل دیا کہ امریکا یوپری یونین کے طرف دیکھے جس میں عبادت گاہیں پابندی کی زد میں ہیں۔ ہندوؤں کے وفد کے لیڈر جو پاکستان آئے ہوئے ہیں جن کا نام شیو پرتاب بجاج ہے نے بیان دیا ہے کہ پاکستان میں ہمارے مذہبی مکامات جن میں کٹاس راج،سادھو بیلہ،انگلاج ماتا اورکرشنامندر سمیت پاکستان میں مندراور عبادت گاہیں محفوظ ہیں۔ سکھ بھی کئی بار کہہ چکے ہیں کہ پاکستان میں سکھوں کے گروداوارے محفوظ ہیں۔ امریکا کو کشمیر میں مظالم اور مذہبی بابندیاں نظرنہیں آتیں۔ جہاں مسجدیں بند کر دی جاتی ہیں۔درگاؤں کو جلایا گیا۔ جمعہ کی نماز پر پابندی لگائے جاتے ہیں۔بلیٹ گن چلا کر انسانوں کو اندھا کر دیا جاتا ہے۔ ایک جانور گائے کے نام پر انسانوں کو قتل کیا جاتا ہے۔سکھوں کے گولڈن ٹمپل پر فوج کشی کی گئی تھی۔ دوسری وجہ پاکستان کی امریکا کی ڈور مور حکم نہ ماننا ہے۔ حکومت پاکستان نے اپنے ملک کے مفاد سامنے رکھ کر فیصلے کیے ہیں جس عوام مطمئن ہیں۔ امریکاایک طرف طالبان سے بات چیت کرانے کی درخواست کرتا ہے تو دوسری طرف پاکستان کو اپنی نام نہاد بلیک لسٹ میں شامل کر تا ہے۔ جو سرا سر ایک زیادتی ہے۔

*****

ریاستی اداروں کی حمایت جاری رکھی جائے گی، سربراہ پاک فوج

راولپنڈی: آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا ہے کہ امن کے لیے تمام ریاستی اداروں کی حمایت جاری رکھیں گے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی چیف کی زیرصدارت جی ایچ کیو میں 216ویں کور کمانڈرز کانفرنس ہوئی جس میں دہشت گردی کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنے کے لیے علاقائی اہمیت کا جائزہ لیا گیا اور داخلی سیکیورٹی کے لیے جاری آپریشن پر پیشرفت اور مشرقی ومغربی بارڈر سمیت لائن آف کنٹرول کی صورتحال کا بھی جائزہ لیا گیا۔

ترجمان پاک فوج کے مطابق کور کمانڈرز نے جیو اسٹرٹیجک بالخصوص علاقائی سیکیورٹی صورتحال کا جائزہ لیا، کانفرنس نے جاری افغان مفاہمتی عمل کی کامیابی کے لیے امید کا اظہار کیا اور افغان جنگ کے پر امن خاتمے کے لیے تمام اسٹیک ہولڈرز کی حمایت کا اعادہ بھی کیا۔

اس موقع پر آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا کہ پاکستان کے عوام کے بہترین وسیع تر مفاد میں ملکی ترقی کی حمایت کرتے ہیں اور امن، استحکام اور ترقی کے لیے تمام اداروں کی حمایت جاری رکھیں گے۔

سام سنگ کی تاریخ کا سب سے مہنگا اسمارٹ فون گلیکسی ایس 10 پلس

سام سنگ گلیکسی ایس 10 کی آمد میں کئی ماہ باقی ہیں مگر اس سیریز کے فونز کے بارے میں لیکس مسلسل سامنے آرہی ہیں۔

اب ایک نئی رپورٹ میں گلیکسی ایس 10 سیریز کے فونز کی رونمائی کی تاریخ، دستیابی کی تاریخ، اسٹوریج، اسکرین سائز اور برطانیہ کے لیے قیمتیں بھی سامنے آگئی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق گلیکسی ایس 10 کو سام سنگ کی جانب سے اسپین میں شیڈول موبائل ورلڈ کانگریس سے ایک ہفتے قبل 20 فروری کو متعارف کرایا جائے گا اور اس کے پری آرڈر بھی اسی وقت شروع ہوجائیں گے جبکہ صارفین کو 8 مارچ کو دستیاب ہوں گے۔

یہ فون 3 مختلف اسکرین سائز میں سامنے آئے گا یعنی ایس 10 لائٹ 5.8 انچ اسکرین، ایس 10 کا ڈسپلے 6.1 انچ جبکہ ایس 10 پلس 6.4 انچ ڈسپلے کے ساتھ ہوگا۔

ان تینوں کی تصاویر گزشتہ دنوں پہلے ہی لیک ہوکر سامنے آچکی ہیں ، جبکہ ایک 5 جی ورژن بھی ہوگا تاہم اس کی تاریخ رونمائی فی الحال سامنے نہیں آسکی۔

اس رپورٹ کی سب سے اہم بات ان تینوں فونز کی قیمتوں اور اسٹوریج کی ہے۔

گلیکسی ایس 10 لائٹ میں کم از کم 128 جی بی اسٹوریج دی جائے گی جس کی قیمت 669 برطانوی پاﺅنڈز (ایک لاکھ 17 ہزار پاکستانی روپے سے زائد) ہوگی، ایس 10 اسٹینڈرڈ کا 128 جی بی اسٹوریج والا ورژن 799 پاﺅنڈز (ایک لاکھ 40 ہزار روپے سے زائد) جبکہ 512 جی بی اسٹوریج والا ماڈل 999 پاﺅنڈز (ایک لاکھ 75 ہزار روپے سے زائد) کا ہوگا۔

آخر میں سب سے بڑا اور اس سیریز کی طاقتور ترین ڈیوائس ایس 10 پلس تین مختلف اسٹوریج ورژن میں دستیاب ہوگا۔

128 جی بی اسٹوریج والا ورژن 899 پاﺅنڈز (ایک لاکھ 57 ہزار روپے سے زائد)، 512 جی بی والا ورژن 1099 پاﺅنڈز (ایک لاکھ 92 ہزار روپے سے زائد) جبکہ ایک ٹی بی اسٹوریج والا ماڈل 1399 پاﺅنڈز (2 لاکھ 45 ہزار روپے سے زائد) ہوگی۔

اس طرح یہ سام سنگ کی تاریخ کا مہنگا ترین اسمارٹ فون بھی ثابت ہوگا جبکہ ریم کے لحاظ سے بھی یہ سب سے طاقتور فون ہے جس میں 12 جی بی ریم دیئے جانے کا امکان ہے۔

ویسے یہ قیمتیں برطانیہ کی ہیں تو یہ کہنا مشکل ہے کہ پاکستان میں بھی یہی قیمتیں ہوں گی یا اس سے بھی زیادہ۔

اس بات کا امکان بھی ہے کہ گلیکسی ایس 10 کے ایک ماڈل میں فنگرپرنٹ سنسر ڈسپلے کے اندر نصب کیا جائے گا۔

سام سنگ کی جانب سے پہلے سے زیادہ طاقتور پراسیسر ممکنہ طور پر کوالکوم اسنیپ ڈراگون 855، نیورول پراسیسنگ یونٹ اور پہلے سے بہتر کیمرے دیئے جائیں گے تاہم ایس 10 لائٹ میں پراسیسر مڈرینج ہوگا جبکہ کچھ فیچرز بھی کم ہوں گے۔

روس نے دنیا کا سب سے زیادہ وزن لے جانے والا ڈرون پیش کردیا

روس: روسی کمپنی نے سب سے زیادہ وزن اٹھانے والے ڈرون کا دعویٰ کیا ہے اور کہا ہے کہ ان کا بنایا ہوا ڈرون پیٹرول انجن اور برقی موٹروں سے پرواز کرتا ہے اور مسلسل 8 گھنٹے تک 220 کلوگرام وزن اٹھاسکتا ہے۔

اب یہ کمپنی گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ سے رابطہ کررہی ہے کیونکہ سب سے زیادہ وزن اٹھانے والے ڈرون کی کامیاب آزمائش حال میں کی گئی ہے۔ روسی علاقے تاتارستان کے ایک ویران علاقے میں اس کی آزمائش کی گئی ہے۔ اگرچہ ڈرون وزن اٹھا کر مقررہ بلندی تک نہ جاسکتا لیکن پھر بھی اس نے وزن اٹھانے کا نیا ریکارڈ ضرور قائم کردیا ہے۔

اسکائف ڈرون کو قوت دینے کے لیے اس میں طاقتور پیٹرول انجن نصب ہے اور ساتھ ہی اس کی پنکھڑیاں برقی قوت سے آگے بڑھتی ہیں۔ دونوں مل کر 220 ہارس پاور کی قوت پیدا کرتے ہیں جبکہ وزن اٹھانے کے بعد کناروں پر لگیں چھوٹی موٹریں اپنی قوت سے ڈرون کو ہوا میں مستحکم رکھتی ہیں۔ کمپنی کے مطابق اگلے مرحلے میں ان کا ڈرون 400 کلوگرام وزن بھی اٹھاسکے گا۔ تاہم یہ ماڈل ہر طرح کا وزن لے جاسکتا ہے۔ اسے فصلوں میں اسپرے کرنے، تلاش کرکے لوگوں کو اٹھانے اور پانی کے جہازوں تک وزن پہنچانے کے لیے ہیلی کاپٹر کی جگہ استعمال کیا جاسکتا ہے۔

اگلے سال پانچ اسکائف ڈرون سے فصلوں پر کیڑے مار دوائیں چھڑکنے کے تجربات بھی کئے جائیں گے۔

ایشیا-پیسیفک: تجارتی کشیدگی سے 27 لاکھ نوکریاں کم ہونے کا خدشہ

اسلام آباد: اقوام متحدہ کے اقتصادی اور سماجی کمیشن برائے ایشیا اور پیسیفک (یو این اسکیپ) نے بڑھتی ہوئی عالمی تجارتی کشیدگی کے تناظر میں اس بات کا اندازہ لگایا ہے کہ اگر یہ تجارتی کشیدگی حل نہیں ہوئی تو خطے کو کم از کم 27 لاکھ نوکریوں کا نقصان دیکھنا پڑ سکتا ہے۔

اسکیپ کی جانب سے جاری کردہ ’تجارت اور سرمایہ کاری رپورٹ 2018‘ میں کہا گیا کہ ہنر مند ورکرز کے مقابلے میں غیر ہنرمند ورکرز کے لیے روزگار کے نقصانات 66 فیصد زیادہ ہوں گے۔

اس میں یہ بھی کہا گیا کہ پیداوار کی تبدیلی اور وسائل کو دوبارہ مختص کرنے کی وجہ سے اس سیکٹر میں لاکھوں مزدور اپنی نوکریاں کھو بیٹھیں گے اور دوسری ملازمت ڈھونڈنے پر مجبور ہوجائیں گے۔

اس کے علاوہ وہ جو کم مہارت رکھتے ہیں، جیسے خواتین، ان کو بے روزگاری کے زیادہ خطرے کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

رپورٹ کے مطابق تجارتی ماحول کی بہتری کے ساتھ ساتھ اسے ڈیجیٹلائز اور آسان بنانے کی کوششوں کے ساتھ علاقائی انضمام نئے اقتصادی مواقع پیدا کرنے میں اہم عنصر ہوگا۔

تاہم لوگوں کی حمایت کے لیے دیگر اعزازی پالیسیاں، جیسے لیبر اور تعلیم کی پالیسیز کے انضمام کی کوششوں اور تجارتی مزاحمت کی وجہ سے متاثر ہوتی ہیں۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ امریکا اور چین کے درمیان تجارتی کشیدگی نے سپلائی چین کو متاثر کیا اور سرمایہ کاروں کے اعتماد کو نقصان پہنچانا شروع کردیا ہے جبکہ 2018 کی پہلی سہ ماہی کے بعد تجارتی ترقی میں کمی اس کا ثبوت ہے۔

اگر یہی تجارتی کشیدگی برقرار رہی تو 2018 کے تقریباً 4 فیصد برآمدی تجارتی حجم کے مقابلے میں 2019 میں برآمدی تجارتی ہدف 2.3 فیصد تک کم ہوسکتا ہے۔

اس کے علاوہ 2018 میں 4 فیصد کم ہونے والی براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری (ایف ڈی آئی) کا گرتا ہوا رجحان آئندہ سال میں بھی جاری رہنے کا امکان ہے۔

رپورٹ کے مطابق ٹیرف میں اضافہ، جو پہلے ہی اپنی جگہ لے چکا ہے، امکان ہے کہ عالمی جی ڈی پی 150 ارب ڈالر تک کم کردے گا اور اگر یہ برقرار رہا تو علاقائی جی ڈی پی 40 ارب ڈالر تک کم ہوسکتی ہے۔

ادارے کی رپورٹ میں یہ بات بھی سامنے آئی کہ 2019 میں اگر ٹیرف جنگ میں مزید اضافہ ہوا اور سرمایہ کاروں اور صارفین کے اعتماد میں کمی آتی تو عالمی جی ڈی پی 400 ارب ڈالر کے قریب کم ہوسکتی ہے جبکہ علاقائی جی ڈی پی بھی 117 ارب ڈالر کم ہوسکتی ہے۔

اسی طرح خطے میں تقریباً 90 لاکھ لوگ کام سے باہر نکل رہے ہیں جبکہ بہت سے ورکرز مختلف شعبوں میں نئی ملازمتوں کی جانب بڑھ رہے ہیں۔

پریا پرکاش نے سنی لیون کو پیچھے چھوڑ دیا

ممبئی: انٹرنیٹ کے سب سے بڑے سرچ انجن گوگل نے بھارت میں  2018 کی سب سے زیادہ سرچ کی جانے والی شخصیات کی فہرست جاری کی ہے حیرت انگیز طور پر فہرست میں پریاپرکاش نے کئی برسوں سے ٹاپ پوزیشن پر رہنےو الی اداکارہ سنی لیون کو پیچھے چھوڑدیا۔

پریاپرکاش واریئر

گوگل کی جانب سے جاری کی جانے والی فہرست کے مطابق بھارت میں رواں سال آنکھ مارنے والی ویڈیو کے ذریعے شہرت حاصل کرنے والی اداکارہ پریاپرکاش کو سرچ کیاگیا ہے۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ بھارت میں گوگل پر گزشتہ برسوں سے سنی لیون ٹاپ پر براجمان تھیں تاہم رواں برس پریا پرکاش نے سنی لیون کو پیچھے چھوڑتے ہوئے نمبر ون پوزیشن حاصل کرلی

نک جونز

حیرت انگیز طور پر بھارتیوں نے رواں سال دوسرے نمبر پر گوگل پر سب سے زیادہ جس شخصیت کو سرچ کیا وہ پریانکا چوپڑا نہیں بلکہ ان کے شوہر نک جونز ہیں۔

سپنا چوہدری

گزشتہ برس بگ باس سیزن 11 میں انٹری دینے والی بھارتی ریاست ہریانا کی ڈانسر سپنا چوہدری کو بھارتیوں نے گوگل پر تیسرے نمبر پر سب سے زیادہ سرچ کیا۔ بگ باس میں شرکت کے باعث سپنا چوہدری معمولی ڈانسر سے راتوں رات شہرت کی بلندیوں پر پنچ گئی تھیں۔

پریانکاچوپڑا

گوگل پر چوتھے نمبر پر سرچ کی جانے والی شخصیت اداکارہ پریانکا چوپڑا رہیں۔ پریانکا کی مقبولیت میں ان کے انٹرنیشنل پراجیکٹس نے اہم کردار ادا کیاجب کہ  شادی کی خبروں کی وجہ سے  بھی انہیں بھارتیوں نے گوگل پر سرچ کیا۔

آنند آہوجا

بالی ووڈ اداکار انیل کپور کے داماد اور سونم کپور کے شوہر آنند آہوجا کو بھارتیوں نے پانچویں نمبر پر گوگل پر سب سے زیادہ سرچ کیا۔ آنند آہوجا کا تعلق فلم انڈسٹری سے نہیں لیکن انہیں اداکارہ سونم کپور کے ساتھ شادی کے باعث شہرت ملی اور لوگوں نے ان کے بارے میں رواں سال زیادہ سے زیادہ جاننے کی کوشش کی۔

سارہ علی خان

بالی ووڈ کے چھوٹے نواب سیف علی خان کی بڑی بیٹی سارہ علی خان رواں سال بھارت میں گوگل پر سب سے زیادہ سرچ کی جانے والی چھٹی شخصیت رہیں۔ سارہ علی خان کو رواں سال بالی ووڈ ڈیبیو کرنے اور وزن میں حیرت انگیز کمی کے باعث شہرت ملی۔

سلمان خان

بھارتیوں نے ساتویں نمبر پر جس شخصیت کو گوگل پر سب زیادہ سرچ کیا وہ بالی ووڈ کے دبنگ اداکار سلمان خان ہیں۔

میگھن مارکل

رواں سال برطانوی شہزادے ہیری کے ساتھ شادی کے بندھن میں بندھن میں بندھنے والی ٹی وی اداکارہ میگھن مارکل کو بھارتیوں نے گوگل پر آٹھویں نمبر پر سب سے زیادہ سرچ کیا۔

انوپ جلوٹا

بگ باس سیزن12 میں شرکت کرنے والے 65 سالہ بھجن گلوکار انوپ جلوٹا  بھی اس فہرست میں شامل ہیں۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ ابھی بگ باس سیزن 12 ختم بھی نہیں ہوا اور انوپ جلوٹا نے مقبولیت میں بڑے بڑے اسٹارز کو پیچھے چھوڑدیا۔ انوپ جلوٹا کو ان کی جواں سال شاگرد جیسلین کے ساتھ تعلقات کے باعث شہرت ملی ہے۔

بونی کپور

بالی ووڈ پروڈیوسر اورآنجہانی اداکارہ سری دیوی کے شوہر بونی کپور رواں سال بھارت میں مقبول ترین سرچ کی جانے والی شخصیت میں دسویں نمبر پر رہے۔

سنی لیون

حیرت انگیز طور پر گزشتہ کئی برسوں سے گوگل پر سرچ کی جانے والی مقبول ترین اداکارہ کا خطاب حاصل کرنے والی سنی لیون رواں سال ٹاپ ٹین میں بھی شامل نہیں۔

Google Analytics Alternative