انٹر ٹینمنٹ

اکشے کمار فلم فائیو میں 5 انوکھے کرداروں میں نظر آئیں گے

ممبئی: بالی ووڈ سپر اسٹار اکشے کمار کو ایکشن اور کامیڈی فلموں میں جاندار اداکاری کی وجہ سے جانا جاتا ہے لیکن اب وہ اپنی نئی آنے والی فلم ’’فائیو‘‘ میں 5 انوکھے کردار کرتے نظر آئیں گے۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق گزشتہ کئی ماہ سے اس قسم کی خبریں زیر گردش ہیں کہ اکشے کمار ہدایتکار امنگ کمار کی فلم میں جلوہ گر ہوں گے لیکن نہ تو اداکار اور نہ ہی ہدایتکار کی جانب سے اپنی نئی آنے والی فلم کے بارے میں کچھ بتایا گیا ہے، تاہم ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ اکشے کمار ’’فلم‘‘ فائیو میں 5 انوکھے کرداروں میں نظر آئیں گے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق فلم کی اسٹوری کو بہت ہی خفیہ رکھا گیا ہے تاہم اس بات کا امکان ہے کہ اکشے کمار کی فلم آئندہ سال کے آغاز میں سینما گھروں کی زینت بن جائے گی۔ اس کے علاوہ تین فلمیں جولی ایل ایل بی ٹو، کریک اور ٹوائلٹ (اک پریم کتھا) بھی اکشے کمار کے ریڈار میں شامل ہیں۔

واضح رہے کہ اکشے کمار فلم نے رواں برس ایئر لفٹ، ہاؤس فل تھری اور رستم جیسی کامیاب فلمیں پیش کیں جس کی وجہ سے فلم انڈسٹری میں آج کل ان کی طوطی خوب بول رہی ہے۔

چینی اداکارہ کی موت کے بعد کینسر کے علاج پر بحث

چین میں ایک اداکارہ کی کینسر کی وجہ سے موت کے بعد سوشل میڈیا پر کینسر کے لیے موزوں طریقہِ علاج پر ایک بحث شروع ہو گئی ہے۔

یہ بحث اس لیے شروع ہوئی ہے کیونکہ چینی اداکارہ نے ابتدائی طور پر روایتی طریقہِ علاج کو کیموتھراپی پر ترجیح دی تھی۔

26 سالہ اداکارہ ژو ٹنگ میں اسی سال لمفوما کی تشخیص ہوئی تھی۔ کینسر کی یہ قسم مدافعت کے نظام پر اثر انداز ہوتی ہے۔

تاہم انھوں نے یہ کہتے ہوئے کیموتھراپی سے اجتناب کیا تھا کہ انھوں نے دوستوں کو کیموتھراپی کی وجہ سے تکالیف برداشت کرتے ہوئے دیکھا ہے اور یہ کہ انھیں اس پر آنے والے اخراجات کی فکر ہے۔

اس کے بجائے انھوں نے کپنگ، آکوپنکچر اور بیک سٹریچنگ جیسے روایتی چینی طریقہ ہائے علاج کا انتخاب کیا۔

لیکن جب ان کی طبیعت بہت زیادہ بگڑ گئی تو انھوں نے کیمو تھراپی شروع کرائی۔ تاہم وہ جانبر نہ ہو سکیں اور سات ستمبر کو ان کا انتقال ہو گیا۔

ژو ٹنگ نےسب سے پہلے جولائی میں اپنے ویبو اکاؤنٹ پر اپنی بیماری کا ذکر تھا جہاں ان کے تقریباً 3 لاکھ فین ہیں۔ بعد میں بھی وہ مسلسل روایتی چینی طب کے ذریعے اپنے علاج کے بارے میں تصویریں پوسٹ کرتی رہیں۔

ان کی پوسٹ کی جانے والی تصویروں پر لاکھوں سوشل میڈیا صارفین نے اپنے ردِ عمل کا اظہار کیا۔ کچھ نے ان کی جلد صحت یابی کے لیے دعا کی جبکہ کئی لوگوں نے انہیں کیمو تھراپی کرانے کو کہا۔

ان کی ایک صارف نے تو یہاں تک کہا کہ چینی نظام علاج کینسر کے سلسلے میں مکمل طور پر بے کار ہے، اگر وہ ان کی نہیں سنتی تو کم از کم انہیں ڈاکٹر کی تو سننی چاہیے۔

اداکارہ، جو سات بہن بھائیوں میں سے ایک ہیں، نے کہا کہ انھوں نے تمام زندگی اپنے بھائی کی ٹیوشن، والدین کے قرض اور گھر خریدنے کے لیے سخت محنت کی ہے لیکن خود پر پیسہ خرچ کرنا انہیں کبھی بھی اچھا نہیں لگا۔

ان کی وفات کے بعد چین میں ایک شدید بحث چھڑ گئی ہے کہ اگر وہ کیمو تھراپی کراتیں تو کیا وہ بچ سکتی تھیں۔ اس سلسلے میں چینی سوشل میڈیا پلیٹ فارم سینا ویبو پر ’ژو ٹنگ کی موت اور چینی طریقہ علاج‘ کے نام سے ایک ہیش ٹیگ بھی شروع کیا گیا۔

کچھ سوشل میڈیا صارفین نے کہا کہ روایتی چینی طریقہِ علاج کو اداکارہ کی موت کا ذمہ دار نہ ٹھہرایا جائے۔

کچھ دیگر افراد کا خیال تھا کہ انہیں دونوں طرح کے طریقہِ ہائے علاج کو اختیار کرنا چاہیے تھا تاکہ کیمو تھراپی ان کے ٹیومر کا علاج کرتی جبکہ روایتی چینی طب بیمارے کے دیگر پہلوؤں کا علاج کرتی۔

کئی سوشل میڈیا صارفین ایسے بھی ہیں جنھوں نے اس بحث میں حصہ نہیں لیا لیکن ادکارہ کی وفات پر دکھ کا اظہار کیا۔

سلمان اور کترینہ 4 سال بعد ایک بار پھر فلم میں ساتھ جلوہ گر ہوں گے

ممبئی: بالی ووڈ کے دبنگ سپر اسٹار سلمان خان اپنی سابقہ محبوبہ کترینہ کیف کے ساتھ 4 سال بعد فلم ’’ٹائیگر زندہ ہے‘‘ میں دوبارہ جلوہ گر ہوں گے۔

بالی ووڈ اسٹار سلمان خان اور کترینہ کیف کے درمیان طویل عرصہ معاشقہ رہا ہے لیکن 2012 میں دونوں کی ایک دوسرے سے علیحدگی کے بعد سلو میاں نے ان کے ساتھ فلموں اور اشتہارات میں کام کرنے سے انکار کردیا تھا جب کہ کترینہ اور رنبیر پور میں دوریوں کے بعد اب سلو میاں اور باربی ڈول میں قربتیں بڑھ گئی ہیں جس کے بعد اب سلو میاں نے اداکارہ کے ساتھ  کام کرنے کو تیار ہیں۔

بھارتی میڈیا کے مطابق یش راج فلمز نے 2012 میں ریلیز ہونے والی فلم ’’اک تھا ٹائیگر‘‘ کا سیکوئل بنانے کا اعلان کیا ہے جس میں سلمان خان کے ساتھ اداکارہ کترینہ کیف ایک بار پھر ایکشن میں نظر آئیں گی جب کہ فلم کی ہدایتکاری کے فرائض علی عباس ظفر سرانجام دیں گے اور فلم اگلے سال کرسمس کے موقع پر ریلیز کی جائے گی۔

 

ماضی کے اداکار لاڈلا کسمپرسی کی حالت میں انتقال کر گئے

ماضی کے اداکار لاڈلا کسمپرسی کی حالت میں انتقال کر گئے۔ اداکار لاڈلا کی لاش میو اسپتال لاہور کی ایمرجنسی کے باہر زمین پر گیارہ گھنٹے سے زائد لاوارثوں کی طرح پڑی رہی۔

ذرائع کے مطابق اداکار لاڈلا کی لاش پر کیڑے مکوڑے رینگتے رہے جبکہ اسپتال انتظامیہ نے لاش اٹھاناگوارانہ کیا۔ میڈیا کے پہنچنے پر اسپتال انتظامیہ میں کھلبلی مچ گئی اور عملہ لاش اندر لےگیا۔

عید کے موقعے پر صرف پاکستانی فلمیں

پاکستان میں اس بار عید کے موقعے پر کوئی بھی انڈین فلم نمائش کے لیے پیش نہیں کی گئی اور صرف پاکستانی فلموں کے درمیان ہی مقابلہ ہے۔

طویل عرصے کے بعد ایسا ہوا ہے جب پاکستان میں عید کے تہوار پر کوئی انڈین فلم نمائش کے لیے پیش نہیں کی گئی۔

عید الاضحیٰ کے موقعے پر تین پاکستانی فلمیں نمائش کے لیے پیش کی گئیں جن میں ’ایکٹر ان لا،‘ ’زندگی کتنی حسین ہے‘ اور ’جانان‘ شامل ہیں۔

اس کے علاوہ بعض سینماؤں میں عاشر عظیم کی متنازع فلم ’مالک‘ بھی دکھائی جا رہی ہے جس پر وفاقی وزارتِ اطلاعات کی جانب سے اپریل میں پابندی عائد کر دی گئی تھی۔ تاہم گذشتہ ہفتے سندھ ہائی کورٹ نے یہ پابندی اٹھانے کا حکم صادر کیا تھا۔

’ایکٹر ان لا‘ میں کی کاسٹ میں انڈیا کے معروف اداکار اوم پوری بھی شامل ہیں ۔

گذشتہ برسوں میں عید کے موقعے پر پاکستانی سینماؤں میں صرف انڈیا فلمیں ہی نمائش کے لیے پیش کی گئیں اور کوئی بھی پاکستانی فلم سینما گھروں کی زینت نہیں بن سکی۔ دو ماہ قبل عید الفطر کے موقعے پر ایک پاکستانی فلم کے ساتھ انڈین فلم ’سلطان‘ بھی دکھائی گئی تھی۔

اس سے پہلے پاکستانی سینما گھروں کے مالک نے عید کے موقعے پر پاکستانی فلم نہ ہونے کی وجہ سے پرانی پاکستانی فلموں کی نمائش کی ۔

Image copyrightFB MAALIK
Image caption’مالک‘ پر پابندی تو اٹھ گئی ہے تاہم اسے سینماؤں میں رات کو آخری شو میں دکھایا جا رہا ہے

عید پر فلم بینوں کو نئی فلموں کا انتظار ہوتا ہے جبکہ سینما مالکان کے لیے بھی یہ تہوار کاروباری اعتبار سے بڑے منافع بخش ہوتا ہے اور اس لیے ان کی کوشش ہوتی ہے کہ انھیں عید پر معیاری فلمیں مل جائیں ۔

پاکستانی فلمی صعنت کو یہ شکایت رہی ہے کہ عید پر پاکستانی فلموں کے ساتھ انڈین فلمیں بھی نمائش کے لیے پیش کی جاتی ہیں جس کی وجہ سے پاکستانی فلمیں کو پذیرائی نہیں ملتی۔

لاہور کے ایک سینما کے آپریشن مینجر جہانزیب علی نے بی بی سی کو بتایا کہ پاکستانی فلموں کی نمائش سے جو توقعات تھیں وہ پوری نہیں ہو سکیں۔ ان کے بقول سینما انڈسری کے فروع کے لیے ضروری ہے کہ پاکستانی فلموں کے ساتھ ساتھ انڈین فلموں کی نمائش ہونی چاہیے ۔

جہانزیب علی کے مطابق عید پر ایک ساتھ تین پاکستانی فلموں کی نمائش سے یہ شکوہ ختم ہو جائے گا کہ پاکستانی فلموں کی حوصلہ افزائی نہیں کی جاتی۔

فلم ’مالک‘ پر عائد پابندی ہٹا دی گئی

سندھ ہائی کورٹ نے فلم مالک پر عائد پابندی ختم کرتے ہوئے فلم کی پورے ملک میں نمائش کی اجازت دے دی ہے۔

یاد رہے کہ پاکستانی فلم مالک آٹھ اپریل کو ریلیز کی گئی تھی جس کی نمائش کے تین ہفتے کے بعد اس فلم پر وفاقی وزارتِ اطلاعات کی جانب موشن پکچرز آرڈیننس کی شق نو کے تحت 26 اپریل کو پابندی عائد کر دی گئی تھی۔

اس سے پہلے اس فلم کی برآمد پر بھی پابندی عائد کر کے بین الاقوامی نمائش روک دی گئی تھی۔

مالک کے ہدایت کار اور مرکزی کردار عاشر عظیم نے بی بی سی کو بتایا کہ سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس سجاد علی شاہ کی سربراہی میں قائم ڈویژنل بینچ نے متفقہ طور پر فلم مالک پر عائد پابندی یکسر ختم کرنے کی ہدایت کی ہے۔

اس موقعے پر وفاق کے وکیل نے اس فیصلے پر اپیل کرنے کے لیے دس روز کی استدعا کی جو مسترد کر دی گئی۔

عاشر عظیم نے بتایا مالک پاکستانی فلم انڈسٹری کی ترقی کی خاطر کئی سینیما گھروں میں آئندہ جمعے سے نمائش کے لیے پیش کی جا رہی ہے۔

انھوں نے کہا کہ یہ بہت مشکل عمل تھا مگر تقسیم کاروں اور سینیما مالکان نے پاکستانی فلمی صنعت کی ترویج کے لیے یہ قدم اٹھایا ہے ورنہ سینیماؤں میں جگہ نہیں تھی۔

انھوں نے مزید بتایا کہ حکومت نے آٹھ اگست کو فلم کی برآمد پر پابندی عائد کی تھی تاہم وہ اس سے پہلے جولائی ہی میں فلم مالک کو آسٹریلیا، نیوزی لینڈ، امریکہ، کینیڈا اور برطانیہ برآمد کر چکے تھے اس لیے ان ممالک میں اس فلم کی نمائش اگست میں کی گئی تاہم خلیجی ممالک میں اس فلم کو نمائش کے لیے پیش نہیں کیا جا سکا۔

سینسر بورڈ کے مطابق اس فلم میں متعدد جگہ پر وزیرِ اعلیٰ یا چیف منسٹر کا لفظ آیا تھا جو قابلِ اعتراض ہے

اس فلم کی کہانی ایک ایسے سابق ایس ایس جی کمانڈو کی ہے جو بعد ازاں اپنی ذاتی سکیورٹی کمپنی کھولتا ہے اور اسے ایک صوبے کے وزیرِ اعلیٰ کی حفاظت کی ذمہ داری ملتی ہے تاہم وہ وزیر اعلیٰ ایک انتہائی بدعنوان شخص ہوتا ہے جو خواتین کی آبروریزی میں بھی ملوث ہوتا ہے۔ اسی وجہ سے فلم کا ہیرو اسے مار کر خود کو پولیس کے حوالے کر دیتا ہے۔

اس سے پہلے سندھ سینسر بورڈ نے اس فلم کا سینسر سرٹیفکیٹ معطل کر دیا تھا کیونکہ سینسر بورڈ کے مطابق اس فلم میں متعدد جگہ پر وزیرِ اعلیٰ یا چیف منسٹر کا لفظ آیا تھا۔ شکایت کے بعد عاشر عظیم نے وہ لفظ ہٹایا دیا اور یہ فلم ریلیز کردی گئی تاہم اُسی شام وفاقی وزارتِ اطلاعات و نشریات نے اس فلم پر پابندی عائد کر دی۔

وفاقی حکوت کا موقف تھا کہ اس فلم میں افغان جنگ کے ایک شدت پسند کو ہیرو کے طور پر پیش کیا گیا ہے جس کی وجہ سے اسے پابندی کا سامنا ہے۔

عاشر عظیم نے بتایا کہ ان کی فلم نے پابندی سے پہلے تقریباً تین ہفتوں کے دوران چار کروڑ کا کاروبار کیا تھا۔

نشاء ملک مرحومہ کی ڈبیو فلم ’’بیسٹ آف لک‘‘ عیدالاضحیٰ پرریلیزکی جائے گی

 لاہور: ماڈل واداکارہ نشاء ملک مرحومہ کی ڈبیو فلم ’’بیسٹ آف لک‘‘ عیدالاضحیٰ پر میٹروپول سمیت دیگر سینماؤں میں نمائش ہوگی۔

ماڈل واداکارہ نشاء ملک مرحومہ کی ڈبیو فلم ’’بیسٹ آف لک‘‘ عیدالاضحیٰ پر میٹروپول سمیت دیگر سینماؤں میں نمائش ہوگی، جس کی دیگر کاسٹ میں اداکارہ زارا ملک ، راحیلہ آغا، عباس باجوہ، فہد ملک ،  اچھی خان شامل ہیں۔

ہدایتکار اے حفیظ نے کہا کہ نشاء  ملک کی بطور اداکارہ پہلی فلم تھی مگر اس  نے  اپنے کردار کو بخوبی نبھایا، اس کی پرفارمنس  کو دیکھتے ہوئے اپنی اگلی فلم میں کاسٹ کرنے کا فیصلہ کرلیا تھا۔

انھوں نے کہا کہ اس کی اچانک موت نے مجھ سمیت پوری ٹیم کو دکھ ہوا اور ہم اس کو مس کر رہے ہیں۔فلم ’’بیسٹ آ ف لک‘‘ میں اپنے کام کی وجہ سے وہ ہمیشہ یاد رکھی جائے گی۔

ابھیشیک کی دوستوں کو ایشوریا سے دوررہنے کی دھمکی –

ممبئی: بالی ووڈ انڈسٹری میں معروف ہدایتکار کرن جوہر کی نئی آنے والی فلم “اے دل ہے مشکل” کے پرومو نے آتے ہی دھوم مچادی ہے، جس میں سب سے زیادہ توجہ کا مرکزاداکارہ ایشوریا رائے بچن بنیں جہاں وہ انتہائی خوبصورت لگ رہی ہیں اور سب ہی ان کی تعریفوں کے پل باندھنے لگ گئے ہیں۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بالی ووڈ انڈسٹری میں اپنی کاسٹ کی وجہ سے سب سے زیادہ انتظارکرائے جانے والی فلم “اے دل ہے مشکل” کے پرومونے آتے ہی دھوم مچادی ہے اورایشوریا رائے بچن کی خوبصورتی کےسب ہی گُن گارہے ہیں جس کے بعد سب سے زیادہ ان کے شوہرابھیشیک بے چین ہوگئے ہیں جہاں انہوں نے اپنی بیوی کی تعریف زیادہ کرنے والوں کو ان سے دوررہنے کی دھمکی دے دی ہے۔

پرومو کے بعد اداکارہ کے سب ہی دیوانے ہوگئے ہیں، ابھیشیک بچن کی بہترین دوست اوراداکارہ پریٹی زنٹا جو ان کے ساتھ متعدد فلموں میں کام کرچکی ہیں، وہ بھی ایشوریا کی تعریف کیے بنا نہیں رہ سکیں۔ پریٹی نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹرپرکہا کہ وہ اس وقت فلم اے دل ہے مشکل کا پرومودیکھ رہی ہیں اورپرومو دیکھنے کے بعد ایشوریا رائے بچن کی دیوانی ہوگئیں ہیں کیونکہ وہ بہت خوبصورت لگ رہی ہیں۔

Google Analytics Alternative