قومی

میرے بنیادی حقوق بری طرح سلب کیے جارہے ہیں، نوازشریف

لاہور: سابق وزیراعظم نوازشریف کا کہنا ہے کہ میرے بنیادی حقوق سلب کیے جارہے ہیں اور ایسا ماحول بنایا جارہا ہے کہ میں وکیل کی خدمات سے بھی محروم ہوگیا ہوں۔

ماڈل ٹاؤن لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے مسلم لیگ (ن) کے قائد نوازشریف کا کہنا تھا کہ خواجہ حارث آج میرے ریفرنس سے دستبردارہوگئے کیوں کہ چیف جسٹس نے کہا تھا کہ ایک ماہ کے اندرہمارے کیس کا فیصلہ دیا جائے جو کسی بھی وکیل کے لیے ممکن نہیں جب کہ نئے وکیل کے لیے احتساب عدالت سے وقت مانگا ہے لیکن ایسی ہی اطلاعات دوسرے وکیل کی جانب سے بھی آ رہی ہیں کہ وہ اتنے کم وقت میں دلائل مکمل نہیں کرسکتے۔

نوازشریف کا کہنا تھا کہ کیا نیب کے دوسرے مقدمات کی روزانہ کی بنیاد پرسماعت ہوتی ہے، میں جس عدالت میں پیش ہورہا ہوں اس میں بھی 40 دیگرمقدمات ہیں، کیا کوئی ایک مقدمہ بھی ایسا ہے جس کی مانیٹرنگ سپریم کورٹ کا جج کررہا ہو، لیکن یہ اپنی نوعیت کا عجیب مقدمہ ہے جو چل تو احتساب کورٹ میں رہا ہے لیکن ڈوریں سپریم کورٹ سے ہلائی جا رہی ہیں۔

مسلم لیگ (ن) کے قائد کا کہنا تھا کہ مجھے حق دفاع سے محروم کیا گیا، اپنی اہلیہ سے ملنے کی اجازت بھی نہیں دی جارہی جب کہ میرے وکیل کو چھٹیوں اور مقررہ اوقات کے بعد بھی سماعت جاری رکھنے کا کہا گیا، آج تک کسی وکیل کومجبورنہیں کیا گیا کہ وہ سارا دن اورچھٹی والے دن بھی پیش ہو، یہ قانون و انصاف کا کھلا مذاق اڑانے کے مترادف ہے۔

نوازشریف نے کہا کہ ریفرنسزمیں تاخیر کی ذمہ داری استغاثہ پرعائد ہوتی ہے، ایک ہی الزام کے تحت کئی ریفرنس داخل کیے گئے، استغاثہ اپنے دعوؤں میں ناکام رہا، ریفرنسزمیں بات نہ بنی تومیرے خلاف ضمنی ریفرنس لائے گئے جب کہ ہماری درجنوں درخواستیں رد کی گئیں اور عدالت نے یہ طے کرلیا تھا کہ تینوں ریفرنسزکے فیصلے ایک ساتھ سنائے جائیں گے۔

مسلم لیگ (ن) قائد نے کہا کہ اب تک بہت سے راز کھل چکے ہیں، قانونی تقاضے اہم ہیں یا الیکشن سے پہلے فیصلہ، اور اگر 25 جولائی کے انتخابات سے قبل کوئی فیصلہ کرنا مجبوری ہے تو فیصلہ کردیجیے۔ انہوں نے کہا کہ اس ڈکٹیٹر کی کس طرح بلائیں لی جا رہی ہیں جس نے دو مرتبہ ملک کا آئین توڑا۔

چوہدری نثار کا آزاد حیثیت میں الیکشن میں حصہ لینے کا اعلان

 اسلام آباد: سابق وزیرداخلہ چوہدری نثار نے آزاد حیثیت میں انتخاب میں حصہ لینے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ پارٹی نے ٹکٹ سیاسی یتیموں کو دیے ہیں۔ 

اڈیالہ روڈ پر کارنر میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنما چودھری نثار نے 2018 کے عام انتخابات میں آزاد حیثیت میں انتخاب میں حصہ لینے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ پارٹی نے ٹکٹ سیاسی یتیموں کو دے دیے ہیں لہذا انہوں نے مسلم لیگ (ن) کے ٹکٹ پر الیکشن نہ لڑنے کا فیصلہ کیا ہے اور اب زیادہ محنت کی ضرورت ہے۔

چودھری نثار کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی میں صرف 10 خامیاں ہیں لیکن مسلم لیگ (ن) میں 100 سے بھی زائد خامیاں ہیں جب کہ عورت راج کے مخالف نے آج اپنی بیٹی پارٹی پر مسلط کر دی۔ انہوں نے کہا کہ کارکن الیکشن پر توجہ دیں، بہتر فیصلہ کروں گا جب کہ 34 سال کی رفاقت کا خیال آجاتا ہے ورنہ اگر میں نے منہ کھولا تو یہ شریف کہیں منہ دکھانے کے قابل نہیں رہیں گے۔

سابق وزیر داخلہ  نے کہا کہ میڈیا پر مجھ سے منسوب اکثر بیانات حقیقت پر مبنی نہیں، پچھلے ایک ہفتے سے علیل ہوں اور کسی سیاسی عمل میں حصہ نہیں لیا لیکن آج اپنے آبائی دیہات اور علاقے کے لوگوں سے ایک مختصر ملاقات ضرور ہوئی مگر وہ ایک نجی ملاقات تھی جس میں میڈیا موجود نہیں تھا اور وہاں میں نے اکثر وہ باتیں نہیں کیں جو میڈیا پر آرہی ہیں۔

چوہدری نثار نے کہا کہ میڈیا سنی سنائی باتوں کو مجھ سے منسوب نہ کرے جب کہ میڈیا کے دوستوں کو یقین دلاتا ہوں کہ جیسے ہی صحت میں آفاقہ ہوا میڈیا کے سامنے آوٴں گا اور ساری صورتحال قوم کے سامنے رکھوں گا۔

حمزہ شہباز اور عائشہ احد نے ایک دوسرے کے خلاف مقدمات واپس لے لئے

لاہور: حمزہ شہباز اور ان کی مبینہ اہلیہ عائشہ احد نے ایک دوسرے کے خلاف تمام کیسز واپس لے لیے.

سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے حمزہ شہباز اور عائشہ احد کیس کا فیصلہ سنادیا اور حمزہ شہباز اور عائشہ احد نے ایک دوسرے کے خلاف تمام کیسز واپس لے لیے ہیں۔ چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے کہا ہے کہ دونوں فریقین کے درمیان معاملات طے پاچکے ہیں اب دونوں ایک دوسرے کے خلاف بیان بازی نہیں کریں گے اور جن شرائط پر حمزہ شہباز اور عائشہ احد میں مفاہمت ہوئی وہ میڈیا پر موضع بحث نہیں بنے گی۔

اس سے قبل آج ہی سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں حمزہ شہباز اور ان کی اہلیہ ہونے کی دعوے دار عائشہ احد سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔ عائشہ احد پر تشدد کے الزام میں حمزہ شہباز عدالت میں پیش ہوئے۔ سپریم کورٹ کے روبرو عائشہ احد نے مؤقف اختیار کیا کہ ان کی حمزہ شہباز سے 2010 میں شادی ہوئی۔ عدالت کے استفسار پر حمزہ شہباز نے عائشہ احد سے شادی سے صاف انکار کردیا۔ چیف جسٹس نے کہا کہ اگر آپ دونوں کہیں میں تو میں ثالث کا کردار ادا کرسکتا ہوں ، یا پھر معاملے کی تحقیقات کے لیے جے آئی ٹی تشکیل دے دیتا ہوں۔

کسی کوحق نہیں کہ بچوں کو پیدا ہونے سے پہلے مقروض کر دے، چیف جسٹس

لاہور: چیف جسٹس پاکستان جسٹس ثاقب نثارنے ریمارکس دیئے ہیں کہ کسی کو کوئی حق نہیں کہ وہ پیدا ہونے سے پہلے پاکستانی بچے کو مقروض کردے۔

سپریم کورٹ لاہوررجسٹری میں چیف جسٹس پاکستان جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں 3 رکنی بنچ نے پاکستانیوں کے بیرون ملک اثاثے اور اکاؤنٹس کی تفصیلات سے متعلق کیس کی سماعت کی۔ عدالت نے گورنراسٹیٹ بینک اور سیکرٹری خزانہ کے پیش نہ ہونے پر اظہار برہمی کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ بیرون ملک پاکستانیوں کے اکاؤنٹس اور اثاثوں کے حوالے سے سپریم کورٹ کے احکامات پرعمل درآمد نہیں ہو رہا، ہم مفاد عامہ کا اہم ترین مقدمہ سن رہے ہیں جب کہ گورنراسٹیٹ بینک اورسیکرٹری خزانہ کو پرواہ ہی نہیں۔

دوران سماعت چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ کون کہتا ہے کہ ہم نے ایمنسٹی اسکیم کو رد کر دیا ہے، یہ معاملہ تو ہمارے سامنے آیا ہی نہیں، سوئٹزر لینڈ میں پڑے پاکستانیوں کے پڑے اربوں کھربوں کے بارے میں کیا کھوج لگایا ہے، پتہ ہونا چاہیے کہ ہر پاکستانی کے بیرون ملک کتنے اثاثے اور اکاؤنٹس ہیں۔

جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس دیئے کہ پچھلی دو حکومتوں نے کیا کیا، تعلیم، صحت اور پینے کے پانی کا حال دیکھ لیں، زرمبادلہ کو پاکستان سے باہر لے جانے کے لیے کوئی پابندی ہی نہیں لگائی گئی، اربوں کھربوں کا سرمایہ پاکستان سے باہر چلا گیا، برآمدات ختم اور درآمدات بڑھتی جاری ہیں، اسمگلنگ ختم نہیں کرسکے۔ پاکستان میں حکومتوں کی غلط پالیسیوں سے ہر نومولود مقروض ہوگیا، قرضے خود لیتے ہیں اور بوجھ ایسے بچوں پر ڈال دیتے ہیں جو پیدا بھی نہیں ہوئے، کسی کو کوئی حق نہیں کہ وہ پیدا ہونے سے پہلے پاکستانی بچے کو مقروض کر دے، بتایا جائے کہ پاکستان کا ہر بچہ کتنا مقروض ہے؟، بتایا جائے کہ دس سال میں کتنے وزرائے خزانہ نے قرضے لیے اور غیر ملکی دورے کیے۔

سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کی گاڑی کا چالان

 اسلام آباد: موٹروے پولیس اہلکاروں نے  تیز رفتاری پر سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کو 750 روپے جرمانہ کردیا۔

موٹروے پر سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی گاڑی کا چالان ہوگیا۔ موٹر وے پولیس اہلکاروں نے سابق وزیراعظم کی گاڑی کو لاہور راوی ٹول پلازہ کے قریب روکا اور تیز رفتاری پر 750 روپے جرمانہ کردیا۔ گاڑی سابق وزیر اعظم کا ڈرائیور سید مقصود چلا رہا تھا۔

موٹروے پولیس اہلکاروں نے چالان کرنے کے بعد سابق وزیر اعظم کے ساتھ تصاویر بھی بنوائیں۔

پیٹرول کی قیمت میں 4 روپے 26 پیسے اضافہ کردیا گیا

نگراں حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کا اعلان کردیا۔

نگراں حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کا اعلان کردیا، پیٹرول کی قیمت میں 4 روپے 26 پیسے فی لیٹر اضافہ کیا گیا ہے جس کے بعد پیٹرول کی نئی قیمت 91 روپے 96 پیسے فی لیٹر ہوگئی ہے۔ نئی قیمتوں کا اطلاق رات 12 بجے کے بعد ہوگا۔

پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کا نوٹی فکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے جس کے تحت ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 6 روپے 55 پیسے فی لیٹر اضافہ ہوا جس کے بعد نئی قیمت 105 روپے 31 پیسے فی لیٹر ہوگئی ہے جب کہ مٹی کے تیل کی قیمت 4 روپے 46 پیسے اضافے کے بعد 84 روپے 34 پیسے فی لیٹر ہوگئی ہے۔

جانئے آج آپ کا دن کیسا رہے گا

حمل:
21مارچ تا21اپریل

بہتر یہی ہے کہ آپ حالات سے سمجھوتہ کر لیں تاکہ ذہن پر چھایا ہوا غبار ہٹ جائے اور آپ بھی اردگرد پھیلی ہوئی خوشیوں کو اپنے دامن میں سمیٹ کر اپنی زندگی کا حقیقی لطف حاصل کر سکیں۔

ثور:
22اپریل تا20مئی

اگر کاروبار مشترکہ ہے تو پھر اپنے منصوبوں میں شریک کار کو اس وقت شامل کریں جبکہ آپ عملی طور پر قدم اٹھانا چاہتے ہیں، اس طرح کم از کم دوسروں کو آپ کی اچھی سکیموں سے استفادہ کرنے کا فائدہ نہ مل سکے گا۔

جوزا:
21مئی تا21جون

اگر آپ نے احتیاطوں کا دامن مضبوطی کیساتھ تھام کر ہر کام کیا تو پھر کامیاب ہونے سے کوئی نہیں روک سکتا بس اتنی احتیاط اور کر لیں کہ آپکے اندرونی معاملات سے قبل از وقت کوئی شخص بھی واقف نہ ہو سکے۔

سرطان:
22جون تا23جولائی

یہ عرصہ عجیب و غریب حالات کا مجموعہ ثابت ہو سکتا ہے، اگر ایک طرف امید ہو گی تو دوسری طرف کسی نہ کسی پہلو سے ناامیدی کا سامنا بھی کرنا پڑ سکتا ہے، آپ کیخلاف اندرونی طور پر سازشوں کا بازار گرم رہے گا۔

اسد:
24جولائی تا23اگست

جن واقعات کی نشاندہی ہم نے قبل از وقت کر دی تھی یقینا ان کا سامنا آپ کو کرنا پڑا ہو گا۔ ظاہر ہے کہ اچھی نیت رکھتے ہوئے جدوجہد کی جائے تو ناکامی نہیں ہوتی۔

سنبلہ:
24اگست تا23ستمبر

اپنے مخالفین کے ظاہری برتائو پر نہ جایئے یہ بھی ایک سازش ہے بسلسلہ جائیداد آپ کا دیرینہ مقصد پورا ہو سکتا ہے، اپنے جذبات کو مصلحت کا درس دیجئے جذباتیت کا مظاہرہ نقصان دہ ثابت ہو سکتا ہے۔

میزان:
24ستمبر تا23اکتوبر

گھریلو حالات قدرے تسلی بخش رہیں گے لیکن اب آپ ہر بات اپنی ہی منوانے والی عادت ترک کر دیجئے، اپنی شریک زندگی کو بھی رائے اور فیصلے کا اختیار دے دیجئے۔

عقرب:
24اکتوبر تا22نومبر

ماضی کی تلخ یادوں کو بھلا کر حالیہ ملنے والی خوشیوں کو گلے لگا لیجئے، اسی کا نام تو زندگی ہے جو مختصر عرصے کا نام ہے اگر اس مختصر عرصے کو رو دھو کر گزارا جائے تو اسے بدنصیبی کہا جا سکتا ہے۔

قوس:
23نومبر تا22دسمبر

ہر شخص آپ جیسے اچھے خیالات اور ارادوں کا مالک ہے اور یہ کہ ہر شخص آپ کی بھلائی کے لیے بھی کچھ نہ کچھ ضرور کرے گا، اس دنیا میں عموماً نیکی کا صلہ بدی کی صورت میں ملتا ہے۔

جدی:
23دسمبر تا20جنوری

اس میں کوئی شک نہیں کہ آپ ایک باصلاحیت انسان ہیں لیکن یہ بات تو آپ بھی تسلیم کریں گے کہ انسانی صلاحیتیں بھی اسی صورت میں کارآمد رہتی ہیں، جبکہ وقت بھی ساتھ دے۔

دلو:
21جنوری تا19فروری

آپ کی غیر معمولی کامیابی کے سبب حاسدین بھی مختلف طریقوں سے آپ کے خلاف نت نئی افواہیں پھلا سکتے ہیں۔ بہر حال ہم اتنا ہی کہیں گے کہ مخالف کچھ بھی کرے آپ مشتعل نہ ہوں۔

حوت:
20 فروری تا 20 مارچ

عقلمند لوگ اچھے وقتوں کی کمائی کو محض اس لیے بچا کر رکھتے ہیں کہ انھیں احساس ہوتا ہے کہ برا وقت بھی آ سکتا ہے اور برے وقت میں صرف اپنی کمائی ہوئی دولت کام آیا کرتی ہے۔

جاتی امرا والے بچکانہ حرکتوں سےنہ اپنا مذاق اُڑوائیں اورنہ ہی میری تضحیک کریں،چوہدری نثار

اسلام آباد: مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنما چوہدری نثار علی خان کا کہنا ہے کہ جاتی امراء والوں کو کہتا ہوں کہ ڈراموں اور بچکانہ حرکتوں سے نہ اپنا مذاق اُڑوائیں اور نہ ہی میری تضحیک کریں۔

سابق وزیرداخلہ اور مسلم لیگ (ن) کے رہنما چوہدری نثار نے عام انتخابات کے لیے پارٹی ٹکٹ  کے حوالے سے کہا کہ کیا کبھی یہ ہوا ہے کہ پارٹی کے سینئر ترین ارکان جو کئی دفعہ منتخب ہو چکے ہوں وہ بورڈ کے سامنے آکر ٹکٹ کے لئے انٹرویو دیں۔

چوہدری نثار نے کہا کہ پہلے بھی کہہ چکا ہوں کہ نہ ان کے ٹکٹ کا امیدوار ہوں اور نہ ہی اس کا محتاج ہوں لیکن نجانے کیوں مجھے ٹکٹ نہ دینے کا بہانہ بنانے کے لئے مضحکہ خیز ڈرامے کیے جارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت جاتی امرا والوں کو کہتا ہوں کہ ڈراموں اور بچکانہ حرکتوں سے نہ اپنا مذاق اڑوائیں اور نہ ہی میری تضحیک کریں جب کہ بیماری سے صحت یاب ہونے کے بعد سارے امور پر کھل کر اظہارِ رائے کروں گا۔

واضح رہے چوہدری نثار کو عام انتخابات کے لئے ٹکٹ دینے کے معاملے پر نوازشریف اور شہباز شریف میں اختلاف ہوا تھا، شہباز شریف چوہدری نثار کو ٹکٹ دینے کے معاملے پر نرم رویہ رکھتے ہیں لیکن نوازشریف نے ٹکٹ جاری کرنے کے لیے شرط رکھی ہے کہ وہ پہلے درخواست دیں اس کے بعد ہی ٹکٹ جاری کیا جائے گا تاہم چوہدری نثار ٹکٹ کے لیے درخواست دینے سے انکار کرچکے ہیں۔

Google Analytics Alternative