قومی

سعودی عرب میں ذوالحجہ کا چاند نظر آگیا

ریاض:سعودی عرب میں ذوالحجہ کا چاند نظر آگیا جس کے بعد اتوار 12 اگست یکم ذوالحجہ ہوگی۔

عرب میڈیا کی رپورٹ کے مطابق حج کا رکن اعظم وقوف عرفہ پیر 20 اگست کو ادا کیا جائے گا اور منگل 21 اگست کو عیدالاضحیٰ کا پہلا دن ہوگا۔

سعودی سپریم کورٹ کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق ذوالحجہ کے چاندکی شہادتیں موصول ہوگئی ہیں لہٰذا وقوف عرفہ پیر 20 اگست کو اور عید الاضحیٰ منگل 21 اگست کو ہوگی۔

ملائیشیا، انڈونیشیا، برونائی اور یونان میں ذوالحجہ کا چاند نظر نہیں آیا

مختلف ممالک میں ذوالحجہ کا چاند دیکھنے کے لیے اجلاس ہوا جس کے بعد ملائیشیا، انڈونیشیا، برونائی دارالسلام اور یونان میں چاند نظر نہ آنے کا باضابطہ اعلان کردیا گیا۔

عرب اخبار کی رپورٹ کے مطابق ان ممالک میں ہفتے کو چاند نظر نہیں آیا جس کے بعد سرکاری طور پر اعلان کیا گیا کہ یکم ذوالحجہ 13 اگست بروز پیر اور عید الاضحیٰ 22 اگست کو منائی جائے گی۔

سعودی عرب نے پہلے ہی عید الاضحیٰ کے لیے 11 روزہ سرکاری تعطیلات کا اعلان کردیا ہے جبکہ متحدہ عرب امارات نے 5 یوم کی تعطیلات کا اعلان کیا ہے۔

پاکستان میں کل چاند نظر آنے کا امکان

پاکستان میں محکمہ موسمیات نے امکان ظاہر کیا ہے کہ پاکستان میں اسلامی مہینے ذوالحجہ کا چاند 12 اگست نظر آسکتا ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق چاند کی پیدا ئش آج دوپہر 2 بجکر 59 منٹ پر ہوچکی ہے اور فلکیاتی پیرامیٹرز کے مطابق ذوالحجہ کا چاند نظر آنے کا قوی امکان 12 اگست کی شام کو ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق کل ملک کے بیشتر حصوں میں مطلع کبھی صاف اور کبھی جزوی طور پر ابر آلود رہنے کا امکان ہے۔

چاند کی رویت کا حتمی اعلام مرکزی رویت ہلال کمیٹی شہادتوں کا جائزہ لینے کے بعد کرے گی۔ اگر کل یعنی 12 اگست کو چاند نظر آگیا تو پاکستان میں عیدالاضحیٰ 22 اگست بروز بدھ ہوگی۔

عید الاضحیٰ ذوالحجہ کی 10 تاریخ کو منائی جاتی ہے، اس دن مسلمان حج بھی کرتے ہیں جبکہ سنت ابراہیمی پر عمل کرتے ہوئے جانوروں کی قربانی کا فریضہ بھی سرانجام دیتے ہیں۔

پنجاب: نگراں وزیراعلیٰ، وزیر داخلہ کو سیشن کورٹ کا نوٹس

لاہور کی سیشن عدالت نے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے خلاف مبینہ طور پرجانب دارانہ اقدامات اٹھانے پر نگران وزیر اعلی پنجاب حسن عسکری اور وزیر داخلہ شوکت جاوید کے خلاف مقدمے کے اندراج کے لیے دائر درخواست پر سماعت کے بعد نوٹس جاری کردیا۔

ایڈیشنل سیشن جج محمد عارف مجاہد نے سابق وزیر تعلیم رانا مشہود کی درخواست پر سماعت کی اور دونوں فریق کے وکلا کو آئندہ سماعت میں بحث کے لیے طلب کرلیا۔

رانا مشہود نے درخواست میں کہا ہے کہ نگران وزیر اعلیٰ پنجاب، مسلم لیگ (ن) کے کارکنوں کےخلاف انتقامی کارروائیوں میں مصروف عمل رہے ہیں اور مسلم لیگ (ن) کے کارکنان کے خلاف جھوٹے مقدمات درج کیے گئے ہیں۔

انھوں نے حسن عسکری پر الزام عائد کیا کہ نگران وزیراعلی پنجاب نے مسلم لیگ (ن) کی انتخابی مہم کو متاثر کیا ، درخواست گزار

رانا مشہود نے کہا کہ نگران وزیر اعلیٰ پنجاب حسن عسکری اور نگران وزیر داخلہ شوکت سلطان نے 13 جولائی کو نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کے استقبال کے لیے ہونے والی ریلی کو منتشر کروایا۔

مسلم لیگ (ن) کے رہنما نے کہا کہ نگراں وزیر اعلیٰ کے خلاف تھانہ شیرا کورٹ میں درخواست دی مگر مقدمہ درج نہیں کیا گیا اس لیے عدالت نگران وزیر اعلی کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دے۔

عدالت نے نگراں وزیراعلیٰ پنجاب حسن عسکری اور نگران وزیر داخلہ شوکت جاوید سمیت تمام فریقین کو پیش ہونے کا نوٹس جاری کرتے ہوئے سماعت 3 ستمبر تک ملتوی کردی۔ خیال رہے کہ رانا مشہود نے نگراں وزیراعلیٰ پنجاب اور نگراں وزیرداخلہ کے خلاف مقدمے کے لیے درخواست21 جولائی کو سیشن کورٹ میں دائر کی تھی۔

یاد رہے کہ عام انتخابات سے قبل پنجاب میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کے وزیراعلیٰ شہباز شریف اور اور پاکستان تحریک انصاف سے تعلق رکھنے والے اپوزیشن لیڈر میاں محمود الرشید کے درمیان نگراں وزیراعلیٰ کے نام پر عدم اتفاق پر الیکشن کمیشن نے حسن عسکری کو نامزد کر دیا تھا۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) کی جانب سے حسن عسکری کی بطور نگراں وزیراعلیٰ پنجاب تقرری کے خلاف آواز اٹھائی تھی اور انھیں جانب دار قرار دیتے ہوئے الیکشن کمیشن سے اس فیصلے کو واپس لینے کی درخواست کی تھی جس کو مسترد کردیا گیا تھا۔

نندی پور کرپشن کیس میں وزارتِ قانون کے حکام ذمہ دار قرار

اسلام آباد: نیب نے اپنی رپورٹ میں انکشاف کیا ہے کہ نندی پور پاور پلانٹ کرپشن کیس میں وزارت قانون کے اعلیٰ حکام اور افسران ملوث ہیں۔

نندی پور پاور پلانٹ کرپشن کیس میں نیب نے سپریم کورٹ میں عبوری رپورٹ جمع کرادی ہے، جس میں حیران کن حقائق کا انکشاف ہوا ہے۔

نیب کی عبوری رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ نندی پور منصوبہ کا ریکارڈ مل گیا ہے، جس کے مطابق وزارتِ قانون کے اعلیٰ حکام اور افسران کرپشن اور اقدام کرپشن کے مرتکب ہوئے۔ وزارت قانون کی ہی وجہ سے منصوبے پر عملدر آمد میں دو سال کی تاخیر ہوئی۔ وزارت قانون کے حکام اپنی قانونی ذمہ داری ادا کرنے میں ناکام رہے۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ وزارت پانی و بجلی اور وزارت خزانہ کے بارہا رابطہ کرنے کے باوجود وزارت قانون نے معاملہ پر قانونی رائے نہیں دی،  وزارت قانون نے 4 مارچ کو وزارت خزانہ اور پانی و بجلی کو منصوبے سے متعلق فیصلوں کا اختیار دیا، تاہم بعد ازاں پیچھے ہٹ گئی، ان اختلافات کے سبب منصوبے کی لاگت 27 ارب تیس کروڑ تک بڑھ گئی، اسکینڈل میں ملوث ملزمان اور گواہان کے بیان ریکارڈ کیے جا رہے ہیں۔

فضل الرحمان والی بات ہم کہتے تو را ایجنٹ کی مہر لگ جاتی، فاروق ستار

کراچی: ایم کیو ایم کے رہنما فاروق ستار نے کہا ہے کہ اگر مولانا فضل الرحمان والی بات ہم کہتے تو را ایجنٹ کی مہر لگ جاتی۔

کراچی کی انسداد دہشت گردی عدالت میں پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ایم کیو ایم کے رہنما فاروق ستار نے کہا کہ  مولانا فضل الرحمان خوش قسمت ہیں کہ انہیں را کا ایجنٹ نہیں کہا گیا، الیکش کمیشن کے باہر مولانا فصل الرحمن نے جو تقریر کی انہیں ایسا نہیں کہنا چاہیے تھا، اگر غلطی سے ہم میں سے کوئی بھی ایسا کہہ دیتا تو ہمارے خلاف را ایجنٹ کی مہر لگ جاتی۔

فاروق ستار نے کہا کہ حکومت سازی کے لیے پیپلزپارٹی سے رابطہ ہے اور بات چیت ہو سکتی ہے تاہم صوبے میں حکومت بنانے کے لیے باقاعدہ کوئی بیٹھک یا مکالمہ نہیں ہوا، ایم کیو ایم کی ہمیشہ پیپلزپارٹی کے ساتھ بہتر ورکنگ ریلیشن کی خواہش رہی ہے، لیکن گزشتہ 10 سالوں میں بے پناہ کرپشن بھی دیکھنے میں آئی ہے، پیپلزپارٹی حکومت نے سندھ کے شہری اور دیہی عوام میں فرق ختم کرنے کے بجائے بڑھایا ہے، پی پی پی کے سابق وزرا کے خلاف کرپشن کے 180 مقدمات روک دیئے گئے ہیں، کرپشن پی پی کے وزرا نے کی اور کارروائیاں سندھ کے شہری علاقوں میں کی گئیں۔

ایم کیو ایم رہنما نے مزید کہا کہ ضمنی انتخابات میں میرے الیکشن لڑنے کے متعلق فیصلہ رابطہ کمیٹی کرے گی، ایک بار حلقہ 243 خالی تو ہونے دو، بس اسی حلقہ این اے 243 سے سارا فرق صاف ظاہر ہو جائے گا، این اے 243 سے جو 14 اور 4 کا فرق آیا ہے اسی ایک سیٹ پر سارا حساب برابر ہو جائے گا۔

واضح رہے کہ بدھ 8 اگست کو اسلام آباد میں الیکشن کمیشن آف پاکستان کے باہر انتخابات میں مبینہ دھاندلی کے خلاف اپوزیشن کا احتجاجی مظاہرہ ہوا تھا۔  جلسے سے خطاب کرتے ہوئے جے یو آئی (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے پاک فوج پر تنقید کرتے ہوئے کہا تھا کہ 14 اگست کو ہم یوم آزادی مناتے ہیں، لیکن اس بار 14 اگست یوم آزادی کے طور پر نہیں بلکہ جدوجہد آزادی کے طور پر مناسکتے ہیں، 14 اگست سے ازسرنو عوام کی آزادی اور اظہار رائے کی آزادی کی جہدوجہد کا آغاز کیا جائے گا، ہم ملک میں کچھ طاقتوں کو اپنا حاکم تسلیم نہیں کرتے۔

اسد قیصر اور پرویز خٹک نے صوبائی اسمبلی کی نشستیں چھوڑ دیں، ذرائع

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے رہنماؤں اسد قیصر اور پرویز خٹک نے صوبائی اسمبلی کی نشستیں چھوڑ دیں۔

اسد قیصر اور پرویز خٹک قومی اسمبلی کی نشستوں کے ساتھ ساتھ صوبائی اسمبلی کی نشستیں بھی جیتے ہیں، اسد قیصر قومی اسمبلی کے حلقے این اے 18 اور پی کے 44 جب کہ پرویز خٹک این اے 25 اور پی کے 61 اور پی کے 64 سے کامیابی حاصل کی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ قومی اسمبلی میں پی ٹی آئی کے اسپیکر کے امیدوار اسد قیصر اور سابق وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک نے صوبائی اسمبلی کی نشستیں چھوڑ دی ہیں۔
عمران خان کی جانب سے اسد قیصر کو اسپیکر قومی اسمبلی نامزد کیا گیا ہے اور وہ خیبرپختونخوا میں گزشتہ دور حکومت میں صوبائی اسمبلی کے اسپیکر تھے۔

ذرائع کے مطابق سابق وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک کو وفاقی وزیر داخلہ بنائے جانے کا امکان ہے۔وزیراعلیٰ کے پی پر عاطف خان نے عمران خان کا فیصلہ تسلیم کرلیا

دوسری جانب عمران خان کے قریبی ساتھی عاطف خان نے خیبرپختونخوا میں محمود خان کی بطور وزیراعلیٰ نامزدگی کا عمران خان کا فیصلہ تسلیم کرلیاہے۔

عاطف خان کے قریبی رشتے دار اور سابق سینئر وزیر شہرام ترکئی نے کہا کہ عمران خان اور محمود خان سے کل میری اور عاطف خان کی ملاقات ہوئی ہے، ہماری پرویز خٹک سے کوئی ملاقات نہیں ہوئی۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان اور محمود خان کو بتاچکے ان کے ساتھ مل کر کام کریں گے، وزارت اعلیٰ کے معاملے پر عمران خان کا ہر فیصلہ قبول کریں گے، پارٹی میں گروپ بندیوں کے قائل نہیں ہیں، ہم پر واضح کیا گیا کہ محمود خان عمران خان کا امیدوارہے کسی اور کا نہیں، معاملات طے ہوچکے جس نے وفاق میں جانا تھا چلاگیا۔

شہرام ترکئی کا کہنا تھاکہ پرویز خٹک کے ساتھ پانچ سال ڈٹ کرکام کیا، ثابت کیا کہ ہم کام کرنے والے لوگ ہیں۔

بشریٰ بی بی کے سابق شوہرخاورمانیکا نے دوسری شادی کرلی

لاہور: تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کی اہلیہ بشریٰ بی بی کے سابق شوہرخاور فرید مانیکا نے دوسری شادی کرلی۔

پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان کی تیسری اہلیہ اوربہت جلد پاکستان کی خاتون اول کا اعزاز حاصل کرنے والی بشریٰ بی بی کے سابق شوہرخاورمانیکا نے سمیرا آغا نامی 40 سالہ خاتون سے دوسری شادی کرلی۔

خاورمانیکا کے قریبی ساتھی لطیف خان نے ان کی دوسری شادی کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ خاورمانیکا کی شادی لاہور میں انجام پائی جس میں ان کے دوستوں، قریبی رشتہ داروں اوران کے بچوں نے شرکت کی۔ خاورمانیکا بشریٰ بی بی کے سابق شوہر ہیں ان دونوں کی طلاق کے بعد عمران خان نے 6 ماہ قبل بشریٰ بی بی سے شادی کی تھی۔

 واضح رہے کہ بشریٰ بی بی عمران خان کی تیسری بیوی ہیں، اس سے قبل عمران خان نے جمائما گولڈ اسمتھ سے پہلی شادی کی تھی جس سے ان کے دوبیٹے قاسم اورسلیمان ہیں جب کہ دوسری شادی ریحام خان سے کی تھی تاہم یہ شادی صرف 10 ماہ ہی چل سکی بعد ازاں دونوں کے دمیان علیحدگی ہوگئی۔

دہشتگردی کیس میں ایم کیو ایم کنوینئر خالد مقبول مفرور قرار

کراچی: انسداد دہشت گردی عدالت نے ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ خالد مقبول صدیقی کو مفرور قرار دیتے ہوئے وارنٹ گرفتاری جاری کردیے۔

کراچی کی انسداد ہشتگردی عدالت میں بانی ایم کیو ایم کی اشتعال انگیز تقاریر اور 22 اگست کو میڈیا ہاؤسز پر حملے سمیت متعدد مقدمات کی سماعت ہوئی۔  فاروق ستار، خواجہ اظہار، قمر منصور، کنور نوید، عامر خان، ساتھی اسحاق، ریحان ہاشمی، روف صدیقی اور دیگر ملزمان عدالت میں پیش ہوئے۔ ملزمان کے وکلا کو مقدمے کے دستاویزات فراہم کی گئیں۔

پولیس نے تین مقدمات میں حتمی چالان پیش کردئیے جو عدالت نے منظور کرلئے۔ پولیس نے چالان میں ایم کیو ایم پاکستان کے کنویئنر خالد مقبول صدیقی اور بانی ایم کیو ایم کو مفرور قرار دے دیا

عدالت نے ایم کیو ایم بانی اور خالد مقبول صدیقی سمیت دیگر کے وارنٹ گرفتاری جاری کرتے ہوئے حکم دیا کہ ملزمان کو گرفتار کرکے پیش کیا جائے، آئندہ سماعت میں ملزمان پر فرد جرم عائد کی جائے گی۔ عدالت نے سماعت 8 ستمبر تک ملتوی کردی۔

عمران خان 18 اگست کو وزیراعظم کے عہدے کا حلف اٹھائیں گے

بنی گالہ: چیئرمین تحریک انصاف عمران خان 18 اگست کو وزیراعظم کے عہدے کا حلف اٹھائیں گے۔

بنی گالہ کے باہر میڈیا سے بات چیت میں ترجمان تحریک انصاف فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ عمران خان کی تقریب حلف برداری 18 اگست کو ہوگی جب کہ ارکان اسمبلی 13 اگست کو حلف اٹھائیں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ تقریب حلف برداری کی تیاری کل سے شروع ہوگی، عمران خان وزیراعظم یا پنجاب ہاؤس میں نہیں بلکہ منسٹرانکلیو میں قیام کریں گے۔

فواد چوہدری نے کہا کہ بنی گالا میں سیکیورٹی انتظامات عمران خان خود برداشت کررہے ہیں، منسٹرز انکلیو میں گھر کی مرمت کا کام بھی عمران خان خود کریں گے جب کہ ایک پیسہ بھی سرکاری خزانے سے نہیں لیا گیا۔

اس موقع پر پی ٹی آئی رہنما سینیٹر فیصل جاوید کا کہنا تھا کہ عمران خان کی وزیر اعظم کے لیے حلف برداری کی تقریب میں سابق بھارتی کپتان کپل دیو، نوجوت سدھو اور سنیل گواسکر کو مدعو کیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ ورلڈ کپ 1992 کی فاتح پاکستانی ٹیم کے کھلاڑیوں کو بھی تقریب حلف برداری میں شرکت کے لیے دعوت نامے ارسال کر دیے گئے ہیں۔

Google Analytics Alternative