قومی

ایل او سی پر بھارتی فوج کی فائرنگ سے شہری شہید، پاک فوج کا کرارا جواب

راولپنڈی: لائن آف کنٹرول پر بھارتی فوج کی فائرنگ سے ایک شہری شہید جب کہ 9 افراد زخمی ہوئے ہیں۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق بھارتی فوج نے ایک بار پھر سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے اشتعال انگیزی کی ہے اور لائن آف کنٹرول کے ڈنا، دھدنیال، جورا، لیپا ، شردا اور شاہ کوٹ سیکٹر پر شہری آبادی کو نشانہ بنایا ہے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق بھارتی فوج کی فائرنگ سے 26 سالہ نوجوان نعمان احمد شہید ہوگیا جب کہ 9 افراد زخمی ہوئے، زخمیوں میں خواتین اور بچے شامل ہیں، جنہیں اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق پاکستانی فوج کی جانب سے بھی مؤثر جوابی کارروائی کی گئی ہے جس میں 3 بھارتی فوجیوں کی ہلاکت اور متعدد کی زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں جب کہ بھارتی چوکیوں کو بھی شدید نقصان پہنچا۔

راولپنڈی میں پاک آرمی کا طیارہ آبادی پر گر کر تباہ، 2 پائلٹس سمیت 18 افراد جاں بحق

راولپنڈی: پاک آرمی کا چھوٹا تربیتی طیارہ موہڑہ کالو کے علاقے میں آبادی پر گر کر تباہ ہو گیا جس کے نتیجے میں 2 پائلٹس سمیت 18 افراد جاں بحق جب کہ 12 سے زائد زخمی ہوگئے۔

پاک آرمی کا چھوٹا تربیتی طیارہ راولپنڈی کے علاقہ موہڑہ کالو میں آبادی پر گر کر تباہ ہو گیا جس کے نتیجے میں 18 افراد شہید ہوگئے جن میں طیارے میں سوار 2 پائلٹس سمیت عملے کے 5 اہلکار جب کہ گھروں میں سوئے 13 عام شہری شامل ہیں جن میں بچے اور خواتین بھی تھے۔

اسپتال ذرائع کے مطابق حادثے میں 12 سے زائد افراد زخمی ہوگئے جن میں سے زیادہ تر کی حالت انتہائی تشویشناک ہے۔

دوسری جانب آئی ایس پی آر کی جانب سے جاری بیان کے مطابق راولپنڈی موہڑہ کالو میں آبادی پر گرکر تباہ ہونے والا چھوٹا طیارہ پاک آرمی کا ہے جو کہ معمول کے مطابق تربیتی پرواز پر تھا۔ طیارے میں سوار 2 پائلٹ سمیت عملے کے 5 اہلکار شہید ہوئے جن میں پائلٹ لیفٹیننٹ کرنل ثاقب، لیفٹیننٹ کرنل وسیم، نائب صوبیدار افضل، حوالدار ابن امین اور حوالدار رحمت شامل ہیں۔

آئی ایس پی آر کے مطابق پاک فوج کے جوانوں نے جائے حادثہ کو حصار میں لے کر امدادی کارروائیاں شروع کردی ہیں اور شواہد اکٹھے کیے جارہے ہیں۔

ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹر عبدالرحمان نے طیارہ حادثے میں 18 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ مرنے والوں کی تعداد اس سے زیادہ بھی ہو سکتی ہے جب کہ زخمیوں کی تعداد 12 سے زائد ہے۔ انہوں نے بتایا کہ طیارہ آبادی کے جن گھروں پر گرا وہاں لگنے والی آگ پر قابو پا لیا گیا اور کولنگ کا عمل جاری ہے، علاقے کی بجلی منقطع کردی گئی ہے جب کہ لاشوں اور زخمیوں کو اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

وزیراعظم نے روٹی مہنگی ہونے پر ہنگامی اجلاس طلب کرلیا

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے روٹی کی قیمتوں میں اضافے کی وجوہات جاننے کے لیے ہنگامی اجلاس طلب کرلیا۔

وزیراعظم عمران خان نے روٹی مہنگی ہونے کے مسئلے پر پیٹرولیم ڈویژن، وزارت غذائی تحفظ اور دیگر اداروں کے وزرا اور افسران کو طلب کرلیا ہے۔

اجلاس میں وزیراعظم کو بریفنگ دی جائے گی کہ فلور ملز مالکان کتنا منافع لے رہے ہیں اور بنیادی انسانی ضرورت روٹی مہنگی ہونے میں ان کا کیا کردار ہے۔ وزیراعظم کو گیس کی قیمتوں میں اضافے کے اثرات سے بھی آگاہ کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ نئے مالی سال کے بجٹ کے بعد ملک بھر میں روٹی کی قیمت میں اضافہ ہوگیا ہے۔

پاکپتن اراضی کیس میں اینٹی کرپشن ٹیم کی نواز شریف سے جیل میں تفتیش

لاہور: پاکپتن اراضی کیس میں اینٹی کرپشن ٹیم نے سابق وزیر اعظم نواز شریف سے سوا گھنٹہ تفتیش کی اور 15 سوالات پر مشتمل سوالنامہ ان کے سامنے رکھا۔

ذرائع کے مطابق اینٹی کرپشن ساہیوال کی چار رکنی ٹیم کوٹ لکھپت جیل لاہور پہنچی اور پاکپتن اراضی کیس میں نواز شریف سے تفتیش کی۔

تحقیقاتی ٹیم نے 1985 کے کاغذات نواز شریف کے سامنے رکھے اور تفصیلات پوچھیں تو نواز شریف نے جواب دیا کہ34  سال پرانے کاغذات ہیں مجھے کچھ یاد نہیں۔

تحقیقاتی ٹیم نے سوال کیا کہ کیا الاٹمنٹ کے لئے اخبار میں اشتہار دیا تھا، زمین کن بنیادوں پر دیوان قطب کو الاٹ کی گئی اور کن کن افسران کو الاٹمنٹ کا حکم نامہ جاری کیا گیا؟۔

نواز شریف نے پھر یہی جواب دیا کہ بہت پرانا کیس ہے مجھے کچھ یاد نہیں، میں نے تمام قانونی تقاضے پورے کئے تھے مگر تفصیلات یاد نہیں، میں نے آئین و قانون کے دائرے میں رہ کر ہی کام کیا، کبھی اختیارات سے تجاوز نہیں کیا اور پاکستان کی خدمت کی ہے۔ اینٹی کرپشن ٹیم بیان قلمبند کرنے کے بعد جیل سے روانہ ہوگئی۔

 

مقبوضہ کشمیر میں آبادیاتی تبدیلی قابل قبول نہیں، وزیر خارجہ

اسلام آباد: وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ پاکستان کے لیے مقبوضہ کشمیر میں کسی بھی قسم کی آبادیاتی تبدیلی قابل قبول نہیں۔

اسلام آباد میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ وزیراعظم کا دورہ امریکا کامیاب اور مفید رہا، ہم نے دورہ امریکا میں مقاصد حاصل کرلیے ہیں۔ امریکا کو ایران کا مسئلہ نہیں چھیڑنا چاہیے۔

افریقی ممالک سے تعلقات کے حوالے سے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ افریقی ممالک میں تجارت،سرمایہ کاری کےوسیع مواقع ہیں، افریقی ممالک بھی پاکستان کی خدمات کااعتراف کرتےہیں، براعظم افریقا پر ہم ماضی میں توجہ نہیں دے سکے، ستمبر میں افریقی ممالک کے سفارت کاروں کی کانفرنس کریں گے، یورپ میں تعینات کچھ کمرشل قونصلرز کی کارکردگی تسلی بخش نہیں، یورپی ممالک میں مقیم تجارتی قونصلر کو افریقا تعینات کریں گے۔

افغان امن عمل سے متعلق وزیر خارجہ نے کہا کہ پاکستان کی پوری توجہ افغانستان پر ہے اور ایمانداری سے آگے بڑھ رہا ہے، پاکستان افغان امن عمل کا سہولت کار ہے ضامن نہیں ،پاکستان تنہا کچھ نہیں کرسکتا سب کی مشترکہ ذمہ داری ہے، وزیر اعظم افغان طالبان سے ملاقات کی خواہش رکھتے ہیں۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں ریاستی دہشت گردی قابل مذمت ہے، مقبوضہ وادی میں صورتحال تشویش ناک ہے، مقبوضہ کشمیر میں تیزی سے پیش رفت ہورہی ہے، کوئی ایسا عمل جس سے آبادیاتی تبدیلی کا خدشہ ہو وہ قابل قبول نہیں ہے، ہم ڈیموگرافک تبدیلی کےکسی بھی خدشے سے نمٹنے کی کوشش کریں گے، بھارتی حکومت ہمیشہ سے مسئلہ کشمیر کو دو طرفہ مسئلہ قرار دیتی آئی ہے۔ بھارت نے کبھی مسئلہ کشمیر پر ثالثی قبول نہیں کی اور وہ تو شملہ معاہدے کے تحت بھی مذاکرات پر تیار نہیں۔

 

وزیراعظم سے آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس آئی کی ملاقات

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان سے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ اور ڈی جی آئی ایس آئی لیفٹیننٹ جنرل فیض حمید نے ملاقات کی۔

ترجمان وزیراعظم آفس کے مطابق اسلام آباد میں وزیراعظم عمران خان سے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ اور انٹر سروسز انٹیلی جنس (آئی ایس آئی) کے ڈائریکٹر جنرل لیفٹیننٹ جنرل فیض حمید نے ملاقات کی۔ اس موقع پر ڈی جی آئی ایس پی آر میجرجنرل آصف غفور بھی موجود تھے۔

ملاقات میں ملک کی مجموعی سیکیورٹی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا جب کہ وزیراعظم کے حالیہ دورہ امریکا اور افغان امن عمل میں پاکستان کے کردار پر بھی بات چیت کی گئی۔

وزیراعظم کی زیر صدارت اجلاس، وزیر ریلوے کی ایم ایل ون پراجیکٹ پر بریفنگ

 اسلام آباد: وزیراعظم کی زیر صدارت اجلاس ہوا جس میں وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے وزیراعظم کو ایم ایل ون پراجیکٹ پر اب تک کی پیشرفت سے تفصیلی طور پر آگاہ کیا۔

وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت ایم ایل ون منصوبے پر پیش رفت کے سلسلے میں جائزہ اجلاس ہوا جس میں وزیر ریلوے شیخ رشید احمد اور وزیر منصوبہ بندی مخدوم خسرو بختیار نے شرکت کی، اس موقع پر وزیر ریلوے نے وزیراعظم کو ایم ایل ون پراجیکٹ پر اب تک کی پیش رفت سے تفصیلی طور پر آگاہ کیا۔

اجلاس میں وزیراعظم عمران خان نے ایم ایل ون منصوبے پر پیش رفت میں تیزی لانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ ریل کی سواری عام آدمی کی سواری ہے لہذا ریلوے کے سفر اور اثاثوں کو محفوظ بنانے کے لیے ہر ممکن کوشش کی جائے۔

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ ایم ایل ون منصوبہ سی پیک منصوبوں کا نہایت اہم اور تذویراتی پراجیکٹ ہے، منصوبے کی تکمیل سے جہاں نہ صرف ریلوے کے نظام میں جدت آئے گی وہاں عوام کو مال برداری و سفر کی بہتر سہولیات میسر آئیں گی۔

رانا ثنااللہ سے جیل میں ایسا رویہ رکھا گیا جو دشمن سے بھی نہ رکھا جائے، شہباز شریف

اسلام آباد: اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کا کہنا ہے کہ راناثنااللہ کو قید تنہائی میں رکھا گیا ہے اور ان کے ساتھ ایسا رویہ رکھا گیا جو دشمن سے بھی نہیں رکھا جاتا۔

قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے کہا کہ وزیراعظم اور وزیر خارجہ ابھی امریکا یاترا سے واپس آئے ہیں، دورے کے فورا بعد ایک ہی دن دہشتگردوں نے حملہ کر دیا، وزیر خارجہ اس ایوان کو اعتماد میں لیں اور بتایا جائے کون یہ سازش کر رہا ہے، کون افغانستان میں امن کے لیے کوششوں کو خراب کر رہا ہے۔

شہباز شریف نے کہا کہ اس ایوان کے تقدس کو مجروح نہ ہونے دیا جائے، آج اس ایوان میں ہمارے بہت سے اراکین موجود نہیں ہیں، اگر پروڈکشن آرڈر جاری نہ کیے گئے تو آپ سے بہت شکایت ہوگی، اراکین کے پروڈکشن آرڈر جاری نہ ہوئے تو ایوان کی کمزوری سمجھا جائے گا۔

قائد حزب اختلاف کا کہنا تھا کہ آج رانا ثنااللہ سے ملاقات ہوئی ہے، راناثنااللہ کو قید تنہائی میں رکھا گیا ہے، نہ ان کے پاس بیڈ ہے نہ میٹرس ہے، دشمن سے بھی ایسا رویہ نہیں رکھا جاتا جب کہ عرفان صدیقی کو ہتھکڑی لگائی گئی، پتہ لگا کہ ان کا کوئی جرم نہیں تھا، شکر ہے حکومت کو عقل آگئی اور اتوار کو عدالت لگا کر ان کی ضمانت کرائی گئی۔

Google Analytics Alternative