کھیل

احسان مانی کو پاکستان کرکٹ بورڈ کا سربراہ مقرر کیے جانے کا امکان

پاکستان کرکٹ بورڈ میں انتظامی تبدیلی کی قیاس آرائیوں میں شدت آرہی ہے اور ایسے میں انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کے سابق صدر احسان مانی کو پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کا سربراہ مقرر کرنے کی اطلاعات ہیں۔

اس بارے میں احسانی مانی سے رابطہ کیا گیا تو آئی سی سی کے سابق سربراہ نے کہا کہ میں اس وقت مری کے قریب ڈونگا گلی میں ہوں جہاں ٹی وی نہیں آتا اور اخبار ایک دن بعد آتا ہے۔ پی سی بی میں ذمے داریوں کے بارے میں مجھ سے ابھی تک کسی نے رابطہ نہیں کیا ہے۔ اگر مجھ سے رابطہ کیا گیا تو میں اپنی رائے دوں گا۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کے لوگ مجھ سے رابطے میں رہتے ہیں اس لیے کہ میں گزشتہ چھ سات برسوں سے شوکت خانم اسپتال کے بورڈ آف ڈائریکٹرز میں ہوں اور گلیات اتھارٹی میں بھی مجھے ذمے داری دی گئی ہے۔ اس وقت عمران خان کے لیے کرکٹ اہم نہیں ہے وہ حکومت سازی میں مصروف ہیں۔

احسان مانی نے کہا کہ عمران خان کو پتہ ہے کہ مجھ سے کس طرح رابطہ کرنا ہے، میری عام انتخابات کے بعد ابھی تک عمران خان سے بات نہیں ہوئی ہے اگر انہوں نے کرکٹ کے حوالے مجھے سے رابطہ کیا اور رائے مانگی تو میں اپنی دستیابی اور رائے سے انہیں آگاہ کردوں گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ میں اہم ذمے داری دینے کے بارے میں عمران خان یا ان کے کسی مشیر نے مجھ سے رابطہ نہیں کیا ہے، میں بھی اپنے بارے میں خبریں میڈیا کے دوستوں سے سنتا رہتا ہوں۔

خیال رہے کہ پاکستان تحریک انصاف براہ راست نجم سیٹھی کے معاملے پر کوئی پالیسی بیان نہیں دے رہی ہے اور نجم سیٹھی نے بھی خاموشی اختیار کررکھی ہے۔ ان کے قریبی لوگوں کا کہنا ہے کہ وہ اگلے ہفتے اپنے مستقبل کا فیصلہ کریں گے۔ اگر انہوں نے استعفیٰ دینا ہے تو اس کا تذکرہ اپنے کسی مشیر سے نہیں کیا ہے۔

نجم سیٹھی کی انتظامی ٹیم نے اپنے عہدوں کو بچانے کے لیے دوڑ بھاگ شروع کردی ہے جبکہ عمران خان کے قریب رہنے والے سابق ٹیسٹ فاسٹ بولر اور پی سی بی ڈائریکٹر ذاکر خان بورڈ میں نئی انتظامی تبدیلی کے لیے متحرک ہیں۔

انہوں نے کئی موجودہ اور سابق کرکٹرز اور ریجن عہدیداروں کی عمران خان سے بنی گالہ میں ملاقات کا انتظام کرایا تھا۔ ذاکر خان چیف آپریٹنگ آفیسر سبحان احمد کی جگہ لینے کے لیے لابنگ کررہے ہیں۔ تاہم بورڈ کے آئین کے مطابق چیف آپریٹنگ آفیسر کا تقرر بورڈ آف گورنرز ہی کرے گا۔

ذاکر خان 2006میں ڈاکٹر نسیم اشرف کے دور میں چار مختلف شعبوں ڈومیسٹک،انٹر نیشنل کرکٹ، انفرا اسٹرکچر اور گیم ڈیولپمنٹ کے ڈائریکٹر تھے لیکن بعد میں ان کے پاس صرف ڈومیسٹک کرکٹ کا شعبہ رہ گیا۔

پاکستان کے سیاسی اور سماجی حلقوں میں بھی یہ سوال انتہائی دلچسپ موضوع کے طور پرپچھلے چند ہفتوں سے موجود ہے کہ کیا نجم سیٹھی اور ان کے قریبی لوگ پاکستان کرکٹ بورڈ کے منظر سے غائب ہوجائیں گے؟

اس حوالے سے گزشتہ دنوں کراچی کے پانچ ستارہ ہوٹل کے ٹھنڈے کمرے میں جب یہ سوال نجم سیٹھی سے دریافت کیا تو کچھ لمحے کمرے میں خاموشی ہوگئی اور پھر ایسا لگا کہ ماحول میں گرما گرمی آنے والی ہے لیکن نجم سیٹھی نے بظاہر پر اعتماد انداز میں کہا کہ بورڈ کے سرپرست اعلیٰ بننے کے بعد عمران خان اپنے کسی شخص کو پی سی بی میں لانا چاہتے ہیں تو مجھے اشارہ کردیں میں استعفی دے دوں گا۔

انہوں نے یہ بھی کہا تھا کہ نیا چیئرمین مقرر کرنا، پیٹرن ان چیف کا استحقاق ہے لیکن ابھی میں نے عہدے چھوڑنے کا فیصلہ نہیں کیا ہے۔

یاد رہے کہ 2013 کے عام انتخابات کے بعد عمران خان نے کھلم کھلا نجم سیٹھی کو اپنی شکست کا ذمے دار قرار دیا تھا۔ عمران خان نے نجم سیٹھی پر الزام عائد کیا تھا کہ پنجاب کے نگران وزیراعلیٰ کی حیثیت سے انہوں نے مبینہ طور دھاندلی کرائی تھی۔

عمران خان نے اس ضمن میں نجم سیٹھی کے لیے 35 پنکچرز کی اصطلاح بھی استعمال کی تھی جس پر نجم سیٹھی نے عمران خان کے خلاف ہرجانے کا دعویٰ دائر کر رکھا ہے۔

25 جولائی کے عام انتخابات کے بعد نجم سیٹھی نے عمران خان خلاف مسلسل جارحانہ انداز اپنایا ہوا ہے۔ نجم سیٹھی نے ایک سیاسی تجزیہ کار کے طور پر اپنے اخباری مضامین اور سماجی رابطے کی ویب سائٹ کے پیغامات میں عمران خان پر سخت الفاظ میں تنقید کا موقع ہاتھ سے نہیں جانے دیا ہے۔

اس کے برعکس احسانی مانی ،عمران خان کے قریبی لوگوں میں شامل ہوتے ہیں۔ نجم سیٹھی سے شدید اختلافات رکھنے والے بھی ان کی ان کوششوں کو ضرور سراہتے ہیں جو انہوں نے انٹرنیشنل کرکٹ کی پاکستان میں بحالی کے لیے کی ہیں اور سب سے بڑھ کر ان کے کریڈٹ پر پی ایس ایل سب سے بڑی کامیابی کے طور پر موجود ہے لیکن اطلاعات یہ ہیں کہ بنی گالہ نے اسی پی ایس ایل کے آڈٹ کو بنیاد بنا کر نجم سیٹھی کو گھر بھیجنے کی تیاری کر لی ہے۔

شعیب ملک ٹی ٹوئنٹی میں 8 ہزار رنز بنانے والے دنیا کے چوتھے بیٹسمین

لاہور: سابق قومی کپتان شعیب ملک ٹی ٹوئنٹی کرکٹ میں 8 ہزار رنز بنانے والے دنیا کے چوتھے بیٹسمین بن گئے۔

انہوں نے یہ کارنامہ کریبیئن پریمیئر لیگ میں گیانا ایمزون واریئرز کی جانب سے ٹرینیڈاڈ کے خلاف 38 رنز کی اننگز کھیلتے ہوئے انجام دیا ۔ شعیب ملک 8034 رنز کیساتھ ٹی ٹوئنٹی کرکٹ میں 8 ہزار رنز کا سنگ میل عبور کرنے والے دنیا کے چوتھے بیٹسمین بن گئے ہیں۔ سب سے زیادہ رنز بنانے والوں کی فہرست میں کرس گیل 11575 رنز کیساتھ سرفہرست ہیں۔ برینڈن میک کولم 9188 رنز کیساتھ دوسرے جبکہ کیرون پولارڈ 8225 رنز کیساتھ تیسرے نمبر پر ہیں۔

واضح رہے کہ پاکستان کے احمد شہزاد5409، کامران اکمل5106، عمر اکمل5044، محمد حفیظ5001، اظہر محمود 4091 اور شاہد آفریدی 3904 رنز بنا چکے ہیں۔

جیمز اینڈرسن نے لارڈز میں وکٹوں کی سنچری بنا ڈالی

لندن: انگلش فاسٹ بولر جیمز اینڈرسن نے لارڈز میں ٹیسٹ وکٹوں کی سنچری مکمل کرلی۔

ہوم آف کرکٹ کے طور پر مشہور اس تاریخی وینیو پر جیمز اینڈرسن نے 100 واں شکار مرلی وجے کی صورت میں کھیلا، ان کی ان سوئنگ ڈلیوری مرلی وجے کے بیٹ کا اندرونی کنارہ چھوتی ہوئی سیدھی وکٹوں کے عقب میں موجود جونی بیئر اسٹو کے گلوز میں چلی گئی۔

اس طرح جیمز اینڈرسن ایک وینیو میں وکٹوں کی سنچری مکمل کرنے والے دوسرے بولر بن گئے، ان سے قبل مرلی دھرن یہ کارنامہ تین مختلف وینیوز پر انجام دے چکے ہیں، انھوں نے سنہالیز اسپورٹس کلب پر 166، کینڈی میں 117 اور گال میں 111 ٹیسٹ وکٹیں لی تھیں۔ وجے اس میچ میں دونوں مرتبہ کھاتہ کھولے بغیر آئوٹ ہوکر پیئر کا شکار ہوئے۔

 

لارڈز ٹیسٹ: بھارت کو اننگز اور159 رنز سے بدترین شکست

انگلینڈ نے جیمز اینڈرسن کی شاندار باؤلنگ کی بدولت بھارت کو 5 میچوں کی سیریز کے دوسرے ٹیسٹ میں ایک اننگز اور 159 رنز سے شکست دے کر سیریز میں 0-2 کی برتری حاصل کرلی۔

لارڈز میں کھیلے گئے دوسرے ٹیسٹ کے چوتھے روز جب کھیل کا آغاز ہوا تو انگلینڈ نے پہلی اننگز میں 6 وکٹوں کے نقصان پر 357 رنز بنا لیے تھے۔

کرس ووکس نے اپنی ذمہ دارانہ بلے بازی کو مسلسل دوسرے روز بھی جاری رکھا اور 137 رنز کی ناقابل شکست اننگز کھیلی۔

جوز بٹلر اور سیم کیوران نے بالترتیب 24 اور 40 رنز بنا کر ووکس کا ساتھ دیا۔

انگلینڈ نے اپنی پہلی اننگز میں بھارت کے خلاف 289 رنز کی برتری حاصل کرنے کے بعد 7 وکٹوں کے نقصان پر 396 رنز بنا کر اننگز ڈیکلیئر کردی۔

بھارت کی جانب سے محمد شامی اور ہردیک پانڈیا نے 3،3 وکٹیں حاصل کیں۔

بھارت کے بلے باز دوسری اننگز میں بھی جیمز اینڈرسن اور کرس براڈ کے سامنے مکمل طور پر ناکام رہے اور ٹیم کو ایک اننگز سے شکست کا سامنا کرنا پڑا۔

دوسری اننگز میں ویرات کوہلی اور راہانے سمیت بھارت کے 6 بلے باز صرف 61 رنز پر پویلین لوٹ چکے تھے جس کے بعد ہردیک پانڈیا اور ایشون نے اسکور کو آگے بڑھایا۔

ہردیک پانڈیا 116 کے اسکور پر 26 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے جس کے بعد کوئی کھلاڑی ایشون کا ساتھ نہیں دے سکا اور پوری ٹیم 130 رنز پر آؤٹ ہو کر ایک اننگز اور 159 رنز سے ہار گئی۔

ایشون نے آؤٹ ہوئے بغیر 33 رنز بنائے جبکہ بھارت کے 5 بلے باز دوہرے ہندسے کو بھی عبور نہ کرسکے۔

اینڈرسن نے پہلی اننگز میں 5 اور دوسری اننگز میں 4 کھلاڑیوں کو آؤٹ کر کے بہترین باؤلنگ کا مظاہرہ کیا اور لارڈز میں کیریئر کی 100 وکٹیں حاصل کرنے کا ریکارڈ بنالیا۔

انگلینڈ کی جانب سے دوسری اننگز میں کرس براڈ نے بھی 4 وکٹیں حاصل کیں۔

میچ کے بہترین کھلاڑی کرس ووکس قرار پائے جنہوں نے 137 رنز کی شاندار ناقابل شکست اننگز کھیلی۔

یاد رہے کہ انگلینڈ نے برمنگھم میں کھیلے گئے سیریز کے پہلے ٹیسٹ میں بھارت کو سنسنی خیز مقابلے کے بعد 31 رنز سے شکست دی تھی، یہ میچ انگلینڈ کا 1000 واں ٹیسٹ میچ تھا۔

شعیب ملک اور ثانیہ مرزا کی اولاد کس ملک کے شہری ہوں گے؟

ثانیہ مرزا اور پاکستانی کرکٹر شعیب ملک کی شادی کو 8 سال ہوگئے ہیں اور اب ان کے ہاں پہلے بچے کی پیدائش جلد متوقع ہے، تاہم ان کی اولاد پاکستانی ہوگی یا بھارتی شہریت کی حامل، یہ وہ سوال ہے جو دونوں ممالک میں ان کے مداح پوچھتے ہیں اور اب بھارتی ٹینس اسٹار نے اس کا جواب دیا ہے۔

ہندوستان ٹائمز کو دیئے گئے انٹرویو کے دوران ثانیہ مرزا نے شادی اور بچے کے حوالے سے مختلف سوالات کا جواب دیا۔

جب ان سے پوچھا گیا کہ اس جوڑے کا بچہ بھارتی ہوگا یا پاکستانی؟ تو ثانیہ مرزا نے کہا ‘ ہم اپنی ذمہ داریوں سے آگاہ ہیں، مگر ہم شہریت کے معاملے کو سنجیدگی سے نہیں لیتے، یہ شہ سرخیوں میں تو اچھا لگ سکتا ہے، مگر گھر میں ہمارے لیے اس کی کوئی اہمیت نہیں’۔

آسان الفاظ میں ان کا بچہ بھارتی ہوگا یا پاکستانی، اس کا فیصلہ بعد میں ہوگا۔

ثانیہ مرزا نے بچے کی پیدائش کے حوالے سے منصوبہ بندی کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ جب ہماری شادی ہوئی تو ہم جانتے تھے کہ ہم اپنے کیرئیرز سے سمجھوتہ نہیں کرسکتے۔

انہوں نے تسلیم کیا کہ شعیب ملک بچے کے بہت زیادہ خواہشمند تھے ‘ مگر انہوں نے کبھی مجھے کہا نہیں اور نہ ہی دباﺅ ڈالا، میں ان کا بہت زیادہ احترام کرتی ہوں’۔

انٹرویو کے دوران ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا ‘ متعدد افراد کا خیال ہے کہ شعیب اور میں نے دونوں ممالک کو متحد کرنے کے لیے شادی کی، جو کہ درست نہیں’۔

انہوں نے مزید کہا کہ وہ اپنے سسرال سال میں ایک بار جاتی ہیں اور وہاں انہیں بہت زیادہ محبت ملتی ہے جبکہ پورا ملک ان کا احترام کرتا ہے اور انہیں بھابھی کہتا ہے۔

ثانیہ مرزا کا کہنا تھا ‘ میں یہ بھی جانتی ہوں کہ یہ احترام اور محبت میرے لیے ضروری نہیں، بلکہ یہ میرے شوہر کی وجہ سے ہے جو کہ کرکٹ ٹیم کے کپتان رہ چکے ہیں، اسی طرح شعیب جب یہاں آتے ہیں تو انہیں میرے ملک میں محبت اور احترام ملتا ہے’۔

ایشیا کپ؛ کپتان نے بہترین کارکردگی کی ٹھان لی

کراچی: قومی ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے ایشیا کپ میں بہترین کارکردگی کی ٹھان لی، انھوں نے کہاکہ چیمپئنز ٹرافی کی طرح اس ایونٹ میں بھی روایتی حریف بھارت کے خلاف کامیابی حاصل کرنا چاہیں گے۔

کراچی میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے سرفراز نے کہا کہ  ایشیا کپ میں اچھا کھیل پیش کرنے کی کوشش کریں گے، ایونٹ میں ابھی وقت باقی لیکن میں  نے کھلاڑیوں کو تیاری مکمل رکھنے کی  تاکید کر دی ہے، ساتھ ہدایت دی ہے کہ فٹنس پر مکمل توجہ دیں، ہم ایونٹ میں مکمل تیاری کے ساتھ حصہ لیں گے،کپتان نے کہا کہ چیمپئنزٹرافی میں فتح قصہ پارینہ بن چکی،اب ایشیا کپ میں روایتی حریف بھارت کیخلاف کامیابی کی کوشش کریں گے۔

سرفراز احمد نے کہا کہ ملک میں نئے ٹیلنٹ کو سامنے لانے کے لیے گراس روٹ پرکرکٹ کو فروغ دینے کی ضرورت ہے، اس حوالے سے  پی سی بی کا انڈر16 پروگرام قابل ذکر ہے، اسی کی بدولت بابر اعظم، سمیع اسلم، امام الحق، سعد علی اورمیرحمزہ جیسے اُبھرتے ہوئے کرکٹرزکو سامنے آنے کا موقع ملا، امید ہے یہ سلسلہ آئندہ بھی جاری رہے گا۔

محمد حفیظ کی ’’غیر اعلانیہ دھمکیوں‘‘ پر حکام آگ بگولہ

کراچی: محمد حفیظ کی’’ غیراعلانیہ دھمکیوں‘‘ نے پی سی بی حکام کو آگ بگولہ کر دیا۔

محمد حفیظ کی حالیہ ’’ غیراعلانیہ دھمکیوں‘‘ نے پی سی بی حکام کو ناراض کر دیا ہے، آل رائونڈر نے سینٹرل کنٹریکٹ میں اے سے بی کیٹیگری پر تنزلی کے بعد گوکہ کوئی باقاعدہ بیان تو نہیں دیا، البتہ ان کے ’’قریبی ذرائع‘‘ سے یہ خبریں آئی تھیں کہ وہ سخت ناخوش اور ریٹائرمنٹ پر غور کر رہے ہیں۔

چیئرمین پی سی بی نجم سیٹھی نے میڈیا سے بات چیت میں واضح کر دیا کہ وہ کسی کی بلیک میلنگ میں آ کر سینٹرل کنٹریکٹ میں تبدیلی نہیں کرینگے، ان کے انداز کو دیکھ کر حفیظ بیک فٹ پر چلے گئے اور ٹویٹ سے معاملات ٹھیک کرنے کی کوشش کی۔

ذرائع نے بتایا کہ امام الحق اور فخر زمان کے ساتھ ایشیا کپ میں ریزرو اوپنر کی ضرورت تو پڑیگی مگر حفیظ سے حکام ناراض ہیں، اگر معاملات سیٹ نہ ہوئے تو انھیں گھر بیٹھنا پڑے گا، البتہ اگر وضاحت نے بورڈ کو مطمئن کر دیا تو وہ یو اے ای جانیوالے طیارے میں سوار ہو جائینگے، اس صورت میں بھی یہ بات یقینی نہیں ہو گی کہ وہ پلیئنگ الیون کا حصہ بن سکیں۔ واضح رہے کہ زمبابوے سے سیریز کے پانچوں ون ڈے میچز کے دوران انھیں میدان میں نہیں اتارا گیا تھا۔

دوسری جانب ایشیا کپ کیلیے قومی اسکواڈ میں عماد وسیم کی واپسی تقریباً یقینی ہے، وہ پی ایس ایل کے دوران انجری کے سبب کافی عرصے انٹرنیشنل کرکٹ سے دور رہے ، البتہ اب مکمل فٹ ہو کر کیریبیئن پریمیئر لیگ میں جمیکا تالاواز کی نمائندگی کر رہے ہیں، ایک زمانے میں وہ مکی آرتھر کی آنکھوں کا تارا تھے مگر بعد میں رویے اور کمٹمنٹ کی کمی نے کوچ کو بدظن کر دیا، اب انھیں ایک اور موقع دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

عماد نے آخری بار گذشتہ برس اکتوبر میں سری لنکا سے سیریز کے دوران گرین شرٹ زیب تن کی تھی، ان کیلیے ممکنہ طور پر محمد نواز کو جگہ خالی کرنا پڑے گی، وہ زمبابوے کیخلاف صرف ایک ون ڈے کھیل سکے جس میں 2 وکٹیں حاصل کی تھیں،ٹور کے دوران ہی کوچ نے انھیں خبردار کر دیا تھا کہ عماد وسیم فٹ ہو چکے لہذا وہ ٹیم سے باہر ہو سکتے ہیں۔ کمزورحریف کیخلاف بھی2 میچز میں 41 کی اوسط سے صرف ایک وکٹ لینے والے لیگ اسپنر یاسر شاہ ایشیا کپ کیلیے اسکواڈ میں جگہ برقرار نہیں رکھ سکیں گے۔

دوسری جانب کوچ مکی آرتھر نے تربیتی کیمپ سے قبل 28 اگست سے قومی کرکٹرز کو 4روز کیلیے ایبٹ آباد یا کسی دوسرے پُرفضا مقام لے جانے کی تجویز دی ہے،کیریبیئن لیگ اور انگلش کرکٹ میں مصروف قومی کرکٹرز کو 27 اگست تک وطن واپسی کی ہدایت کر دی گئی ہے، وہ ایک ساتھ وقت گذار کر ایشیا کپ و دیگر اہم ایونٹس سے قبل تازہ دم ہوسکیں گے، وقت کی کمی کے سبب فوجی طرز کی ٹریننگ ممکن نہیں البتہ پلیئرز فٹنس بہتر بنانے کیلیے پہاڑ پر چڑھنے، ایکسرسائز و دیگر سرگرمیاں جاری رکھیں گے،ان کے فٹنس ٹیسٹ پہلے ہی لیے جا چکے ہونگے۔

کوچ کا خیال ہے کہ زیادہ لوگوں کی توجہ کا مرکز بنے بغیر ساتھ وقت گذار کر کھلاڑی تروتازہ ہو جائیں گے،واپسی کے بعد ممکنہ طور پر3 ستمبر سے لاہور میں چند روز کے تربیتی کیمپ کا انعقاد کیا جائیگا، مصروف ترین سیزن سے قبل کھلاڑیوں کو تحریک دلانے کیلیے کسی غیرملکی ماہر نفسیات کیساتھ سیشن کا بھی امکان ہے، ٹیم مینجمنٹ کا خیال ہے کہ اس طرح کے لیکچر سے پلیئرز کا اپنی صلاحیتوں پر اعتماد مزید پختہ ہو جاتا اور انھیں کھیل میں مزید نکھار لانے میں مدد ملتی ہے۔

واضح رہے کہ قومی کرکٹ ٹیم کو آئندہ ماہ یو اے ای میں ایشیا کپ کھیلنا ہے، ایونٹ میں روایتی حریف بھارت کیساتھ بھی مقابلے ہونگے، اکتوبر اور نومبر میں اماراتی سرزمین پر ہی آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ سے سیریز بھی شیڈول ہے، دسمبر سے فروری تک ٹیم کو جنوبی افریقہ کا مشکل دورہ کرنا ہوگا۔

بھارتی کرکٹر نوجوت سدھو نے عمران خان کی تعریفوں کے پل باندھ دیئے

بھارتی کرکٹر نوجوت سنگھ سدھو نے پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کی تعریفوں کے پل باندھ دیئے۔

سابق بھارتی کرکٹر اور سیاست دان نوجوت سنگھ سدھو نے اپنے انٹرویو میں کہا کہ ایک سیٹ سے کامیابی کا سفر شروع کرنے والا آج پاکستان کا وزیراعظم بن گیا ہے۔

پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان کی تعریفوں کے پل باندھتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عمران خان کی زبان سے نکلنے والے ہر لفظ پر بھروسہ ہے اور وہ جو بولتے ہیں کر گزرتے ہیں۔

تحریک انصاف نے سابق بھارتی کرکٹرز نوجوت سنگھ سدھو، کپیل دیو اور سنیل گواسکر کو عمران خان کی تقریب حلف برداری میں شرکت کی دعوت دی ہے۔

نوجوت سنگھ سدھو نے عمران خان کی تقریب حلف برداری میں شرکت پر آمادگی ظاہر کردی ہے اور تقریب میں شریک ہونے جلد پاکستان آئیں گے۔

سابق بلے باز کی عمران خان کی تقریب حلف برداری میں شرکت پر آمادگی نے بھارتی میڈیا کو سیخ پا کردیا ہے۔

یاد رہے کہ سنیل گواسکر نے عمران خان کی بطور وزیر اعظم تقریب حلف برداری میں شرکت ست معذرت کی ہے جب کہ بالی وڈ اداکار عامر خان پہلے ہی تقریب میں شرکت سے انکار کرچکے ہیں۔

عمران خان ممکنہ طور پر 18 اگست کو پاکستان کے اگلے وزیراعظم کے طور پر حلف اٹھائیں گے۔

Google Analytics Alternative