کھیل

دوسرا ٹی 20؛ آسٹریلیا نے پاکستان کو 7 وکٹوں سے ہرادیا

ینبرا: آسٹریلیا نے پاکستان کو دوسرے ٹی 20 میچ میں 7 وکٹوں سے شکست دے کر سیریز میں ایک صفر کی برتری حاصل کرلی ہے۔

5 ٹی 20 میچوں پر مشتمل سیریز کے دوسرے میچ میں قومی ٹیم کے کپتان بابراعظم نے ٹاس جیت کر پہلے  بیٹنگ کو ترجیح دی، فخرزمان اور بابر اعظم پر مشتمل اوپننگ جوڑی نے پہلی وکٹ پر 22 رنز جوڑے، فخر زمان کا بلا ایک بار پھر رنز اگلنے میں ناکام رہا اور وہ صرف 2 رنز پر چلتے بنے۔

پچھلے میچ کی طرح حارث سہیل اس میچ میں بھی ایک جیسے انداز میں آؤٹ ہوئے، بائیں ہاتھ کے بیٹسمین نے وکٹ چھوڑ کر اونچی شارٹ کھیلنے کی کوشش کی مگر گیند بلے کے اوپری کنارے پر لگنے کے بعد فضا میں چلی گئی اور وہ 6 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے۔

haris

تیسری وکٹ پر کپتان بابراعظم اور محمد رضوان نے 33 رنز کا اضافہ کیا تاہم محمد رضوان 14 رنز پر چلتے بنے جس کے بعد آصف علی 4 رنز کے مہمان ثابت ہوئے۔

70 رنز پر چار کھلاڑیوں کے پویلین لوٹ جانے کے بعد بابر اعظم اور افتخار احمد نے ذمہ دارانہ بیٹنگ کرتے ہوئے 36 رنز کا اضافہ کیا، اس دوران بابر اعظم نے نصف سنچری بھی اسکور کی لیکن وہ 50 رنز بنا کر رن آؤٹ ہو گئے، ان کی اننگز میں 6 چوکے شامل تھے جب کہ دوسرے اینڈ پر موجود افتخار احمد پراعتماد انداز میں اننگز کو آگے بڑھاتے رہے۔

افتخار احمد نے برق رفتاری سے اسکور میں اضافہ کیا اور وکٹ کے چاروں جانب دلکش اسٹروکس کھیل کر نہ صرف نصف سنچری بنائی بلکہ مجموعے کو 150 تک بھی پہنچایا، انہوں نے 34 گیندوں پر 62 رنز بنائے جس میں 5 چوکے اور 3 چھکے بھی شامل تھے۔

قومی ٹیم نے مقررہ اوورز میں 6 وکٹوں پر 150 رنز بنائے، عماد وسیم 11 رنز اور وہاب ریاض صفر پر پویلین لوٹے۔ آسٹریلیا کی جانب سے آگر نے 2، پیٹ کمنٹس اور رچرڈسن نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

آسٹریلیا کی جانب سے کپتان ایرون فنچ اور ڈیوڈ وارنر نے ہدف کا تعاقب شروع کیا۔ دونوں کھلاڑیوں نے برق رفتاری سے اننگز شروع کی اور 3 اوورز میں 30 رنز بناڈالے، تیسرے اوور کی آخری گیند پر ڈیوڈ وارنر محمد عامر کے ہاتھوں بولڈ ہوگئے، انہوں نے 11 گیندوں پر 20 رنز بنائے۔

وارنر کے بعد فنچ کا ساتھ دینے سابق کپتان اسٹیو اسمتھ آئے، 48 رنز کے مجموعی اسکور پر محمد عرفان نے فنچ کو آؤٹ کیا تو مک ڈرمویٹ میدان میں اترے ، ہدف حاصل کرنے کے لیے دونوں کھلاڑیوں نے اسکور بنانے میں تیزی دکھانا شروع کی تو مک ڈرمویٹ عماد وسیم کا شکار بن گئے، انہوں نے 22 رنز بنائے۔ اسی دوران اسٹیو اسمتھ نے شاندار 50 اسکور کی۔

آسٹریلیا نے 19ویں اوور میں ہی صرف 3 وکٹوں کے نقصان پر ہدف حاصل کرلیا، اسمتھ  51 گیندوں پر 80 جب کہ ٹرنر 8 رنز بناکر ںاٹ آؤٹ رہے۔

واضح رہے کہ آسٹریلیا نے پاکستان کو دوسرے ٹی 20 میچ میں  وکٹوں سے شکست سے کر سیریز میں ایک صفر کی برتری حاصل کرلی ہے۔ سیریز کا پہلا میچ بارش کے باعث کسی بے نتیجہ رہا تھا۔

پی ایس ایل: ٹرانسفر اور ریٹینشن ونڈو کا باضابطہ آغاز

لاہور: ایچ بی ایل پی ایس ایل 2020 کے ڈرافٹ میں سب سے پہلی پک دفاعی چیمپئن کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کرے گی،ڈرافٹ کے لیے پک آرڈر کی ترتیب طے ہونے کے بعد پی ایس ایل کی ٹرانسفر اور ریٹینشن ونڈو باضابطہ طور پر کھول دی گئی۔

ایچ بی ایل پی ایس ایل 2020 کے ڈرافٹ کے لیے مکمل پک آرڈرترتیب دے دیا گیا، مقررہ طریقہ کار کے مطابق دفاعی چیمپئن کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی پہلی، لاہور قلندرز کی دوسری، ملتان سلطانز تیسری، دومرتبہ کی چیمپئن اسلام آباد یونائیٹڈ چوتھی، پشاور زلمی پانچویں اور کرا چی کنگز کو چھٹی باری ملی ہے، خصوصی طور پر تیار کردہ ماڈل سے باقی ماندہ 17 راؤنڈز  کے لیے پک آرڈر کی ترتیب پیرکوطے  کی گئی۔

ڈرافٹ کے لیے پک آرڈر کی ترتیب طے ہونے  کے بعد پی ایس ایل کی ٹرانسفر اور ریٹینشن ونڈو باضابطہ طور پر کھول دی گئی، پالیسی کے مطابق رواں سال ہر فرنچائز گذشتہ ایڈیشن میں شامل زیادہ سے زیادہ 8 کھلاڑیوں کو اسکواڈ میں برقرار رکھ سکتی ہے۔ گذشتہ سال کی طرح اس سال بھی ہر فرنچائز کے 16رکنی  اسکواڈ میں 5 غیر ملکی کھلاڑی شامل ہوں گے۔

رواں سال فرنچائززکو سپلمنٹری کیٹیگری میں شامل 2 کھلاڑیوں میں سے ایک غیرملکی کرکٹر کو چننے کا اختیار دے دیا گیا ہے۔کوئی فرنچائز چاہے تو اس سے فائدہ اٹھاسکتی ہے، تاہم پلئینگ الیون میں کم ازکم 3 اور زیادہ سے زیادہ 4غیرملکی کھلاڑیوں کو شامل کرنے  کی اجازت ہوگی۔

قانون کے مطابق ایچ بی ایل پی ایس ایل ڈرافٹ میں ڈائمنڈ اور گولڈ راؤنڈ کے دوران فرنچائز چاہے تو کسی ایک کھلاڑی کا انتخاب اس کی مقررہ کیٹیگری سے اوپر  لے جاکر بھی کرسکتی ہے، بورڈ  آفیشل وسیم خان نے کہا کہ ایچ بی ایل پی ایس ایل کے مداحوں کے لیے  آئندہ چند روز بھی بہت اہم ہیں کیونکہ اس دوران ہرفرنچائز اپنے اسکواڈ میں شامل کھلاڑیوں کی ری ٹینشن اور ٹریڈ کا اعلان کرے گی، ایونٹ کا آغاز آئندہ سال فروری میں ہوگا۔

ٹوئنٹی 20 ورلڈ کپ؛ آسٹریلیا آئندہ سال میلہ سجانے کیلیے تیار

سڈنی:  آسٹریلیا آئندہ سال ورلڈ ٹی ٹوئنٹی میلہ سجانے کیلیے تیار ہے۔

سڈنی میں www.cricketpakistan.com.pk کے نمائندہ سلیم خالق کو خصوصی انٹرویو میں ورلڈٹوئنٹی کے چیف ایگزیکٹیو نک ہوکلے نے کہا کہ میگا ایونٹ میں مردوں کے میچ 7اور خواتین کے 6 شہروں میں شیڈول کئے گئے ہیں،ٹکٹوں کی فروخت تیزی سے جاری ہے، نرخ بھی مناسب اور 5سے 20 ڈالر تک رکھے گئے ہیں، ہم پوری دنیا سے آنے والے شائقین کو خوش آمدید کہتے ہوئے بہترین سہولیات فراہم کرینگے،آسٹریلیا میں مقیم پاکستانی، بھارتی اور سری لنکن شائقین کی بڑی تعداد بھی میچز دیکھنے کیلیے آئے گی۔

انھوں نے کہا کہ ورلڈکپ مقابلوں کے دوران اسٹیڈیمزسے باہر بھی رونقیں لگائی جائیں گی، افتتاحی روز سڈنی اولمپک پارک میں جشن کا سماں ہوگا، سٹی سینٹرسمیت مختلف مقامات پر بھی میلہ سجایا جائے گا، فین زونز میں  ہر عمر کے شائقین کی دلچسپی کے لوازمات موجود ہوں گے۔

ایک سوال پر نک ہوکلے نے کہا کہ میں جہاں بھی جاؤں مجھ سے پاک بھارت میچ کے بارے میں ضرور پوچھا جاتا ہے، روایتی حریفوں کے مقابلے دنیا بھر کے شائقین کی توجہ کا مرکز بنتے ہیں،رینکنگ پوزیشن کی وجہ سے ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کے پہلے راؤنڈ میں تو ان کا میچ نہیں ہوگا، ہوسکتا ہے کہ سیمی فائنل یا فائنل میں دونوں کا جوڑ پڑجائے، پاکستان اور بھارت کا وارم اپ میچ کرانے کا ابھی کوئی فیصلہ نہیں ہوا۔

پاک آسٹریلیا پہلا ٹی 20، بارش سے رنگ میں بھنگ پڑنے کا خدشہ

سڈنی: پاکستان اور آسٹریلیا کے مابین پہلے ٹی ٹوئنٹی میچ میں بارش کے رنگ میں بھنگ ڈالنے کا خدشہ موجود ہے۔

سری لنکا کیخلاف سیریز میں کلین سوئپ کے بعد ٹی ٹوئنٹی کرکٹ میں عالمی نمبر ون ٹیم کے کپتان سرفراز احمد کو ہٹادیا گیا تھا،کمان نو آموز بابر اعظم کے ہاتھوں میں دی جاچکی، احمد شہزاد اور عمراکمل کا تجربہ ناکام ہوا، شعیب ملک اور محمد حفیظ کو ایک بار پھر نظر انداز کردیا گیا، سرفراز احمد کا خلا وکٹ کیپر بیٹسمین محمد رضوان پر کررہے ہیں، اب نئے کپتان اور نئے کمبی نیشن کیساتھ پاکستان کو سخت جان کینگروز کا چیلنج درپیش ہے۔

اگرچہ گرین شرٹس نے کرکٹ آسٹریلیا الیون کیخلاف وارم اپ میچ میں بہترکارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے مقامی کنڈیشنز سے ہم آہنگی کی نوید سنائی ہے لیکن اتوار کو پہلے ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل میں بچوں سے نہیں مضبوط آسٹریلوی ٹیم کا سامنا ہوگا، پاکستان کی ممکنہ الیون میں وارم اپ میچ کے کھلاڑیوں کو برقرار رکھے جانے کا امکان ہے۔

بابر اعظم، فخرزمان، حارث سہیل تینوں فارم بحال کرچکے،محمد رضوان ڈومیسٹک کرکٹ میں عمدہ کارکردگی کے بعد پر اعتماد ہیں، آصف علی وارم اپ میچ میں کھاتہ نہیں کھول سکے لیکن ان کو برقرار رکھا جا سکتا ہے، افتخار احمد ، عماد وسیم، شاداب خان بیٹ اور بال دونوں سے ٹیم کے کام آسکتے ہیں،تینوں آل راؤنڈرز کا کردار اہم ہوگا، محمد عامر، وہاب ریاض اور محمد عرفان اپنے تجربے کی بدولت کینگروز کیلیے مشکلات پیدا کرنے کی کوشش کریں گے۔

دوسری جانب ڈیوڈ وارنر اور اسٹیو اسمتھ کی واپسی کے بعد میزبان اسکواڈ خاصا متوازن ہوچکا ہے،جارح مزاج گلین میکسویل نفسیاتی مسائل کی وجہ سے اچانک رخصت پر چلے گئے لیکن ڈی آرسی شارٹ ان کا خلا پرکرنے کیلیے موجود ہوں گے،کپتان ایرون فنچ بھی پر اعتماد آغاز فراہم کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں،مچل اسٹارک، پیٹ کمنز، کین رچرڈسن اور بلی اسٹین لیک پر مشتمل پیس بیٹری کیساتھ ایڈم زمپا جیسے کارآمد اسپنرز کی خدمات بھی میسر ہیں۔

وارم اپ میچ کے بعد جمعہ کو پاکستانی کرکٹرز نے آرام کو ترجیح دی،شام کو شاہد آفریدی فا?نڈیشن کی تقریب میں بھی شریک ہوئیہفتے کوبھرپور پریکٹس سیشن ہوگا،مہمان کھلاڑی بیٹنگ، بولنگ اور فیلڈنگ میں اپنی صلاحیتیں نکھارنے کیلیے سرگرم رہیں گے۔ ٹی ٹوئنٹی سیریز کیلیے ٹرافی کی تقریب رونمائی اور کپتانوں کی پریس کانفرنس بھی ہوگی۔

دوسری طرف موسم کی حوالے سے کوئی اچھی اطلاعات نہیں ہیں،سڈنی میں سہ پہر اور شام کو بارش کا 90فیصد امکان ظاہر کیا گیا ہے،طوفانی ہوائیں بھی چل سکتی ہیں، درجہ حرارت کم سے کم 19اور زیادہ سے زیادہ 29رہے گا۔

یاد رہے کہ 20باہمی ٹی ٹوئنٹی مقابلوں میں پاکستان کا پلڑا بھاری رہا ہے،گرین شرٹس نے 12میں کامیابی حاصل کی، 7میں ناکامی کا سامنا کرنا پڑا، ایک میچ ٹائی ہوا،آسٹریلیا میں دونوں ٹیمیں صرف ایک بار مقابل ہوئی ہیں،کینگروز نے سخت مقابلے کے بعد صرف 2رنز سے فتح حاصل کی تھی، 127کے ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے مہمان ٹیم 9وکٹ پر 125رنز بناسکی تھی۔

میچ کے دوران نامناسب زبان استعمال کرنے پر جنید خان کو جرمانہ

کوئٹہ: قائداعظم ٹرافی میں خیبر پختونخوا کرکٹ ٹیم کے فاسٹ باؤلر جنید خان پر میچ فیس کا 40 فی صد جرمانہ عائد کردیا گیا۔

بگٹی اسٹیڈیم کوئٹہ میں قائداعظم ٹرافی میں خیبر پختونخوا اور بلوچستان کے درمیان میچ کھیلا گیا۔ میچ کے دوران جنید خان پر نامناسب زبان استعمال کرنے کا الزام تھا، جنید خان کو پی سی بی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کرتے ہوئے لیول 1 جرم کا مرتکب پایا گیا۔ آن فیلڈ امپائرز شمیم انصاری اور غفار کاظمی نے جنید خان کو آرٹیکل 2.6 کی خلاف ورزی کرنے پر چارج کیا۔ جنید خان کی جانب سے اعتراف جرم کرنے پر میچ ریفری محمد اسلم نے جرمانے کی سزا سنائی۔

دوسری جانب سلو اوور ریٹ کے باعث سنٹرل پنجاب کرکٹ ٹیم پر جرمانہ عائد کردیا گیا۔ قوانین کے مطابق سنٹرل پنجاب کرکٹ ٹیم پر 40 ہزار روپے جرمانہ عائد کیا گیا۔ سنٹرل پنجاب کرکٹ ٹیم نے قائداعظم ٹرافی کے پانچویں راؤنڈ میں سندھ کے خلاف میچ میں مقررہ وقت سے 4 اوورز کم کیے۔ میچ ریفری ندیم ارشد نے سنٹرل پنجاب کرکٹ ٹیم پر جرمانہ عائد کیا۔

بال ٹمپرنگ؛ احمد شہزاد پر جرمانہ عائد کر دیا گیا

لاہور: سنٹرل پنجاب کے کپتان کو سندھ کیخلاف قائد اعظم ٹرافی میچ کے دوران گیند کی حالت بدلنے سے متعلق پی سی بی کے ضابطہ اخلاق کے لیول ون کے جرم کا مرتکب پایا گیا ہے۔

بال ٹمپرنگ کرنے والے کھلاڑی کی شناخت نہ ہوپانے کے باعث احمد شہزاد کو نان آئیڈینٹی فکیشن ضابطے کی بناءپر بطور کپتان چارج کیا گیا۔

میچ کے دوران سندھ کی پہلی اننگز میں 17ویں اوور میں آن فیلڈ امپائرز نے گیند کا معائنہ کیا تو اس میں تبدیلی دیکھی گئی، آن فیلڈ امپائرز ضمیر حیدر اور محمد آصف نے احمد شہزاد کو پی سی بی کوڈ آف کنڈکٹ کے آرٹیکل 2.14 کی خلاف ورزی کرنے پر چارج کیا۔انہوں نے جرم تسلیم نہیں کیا، میچ ریفری ندیم ارشد نے کیس کی سماعت کے بعد 50فیصد جرمانہ عائد کردیا۔

احمد شہزاد کا موقف ہے کہ میچ کے دوران گیند کی حالت میں تبدیلی ایک قدرتی عمل تھا، آفیشلز کو قائل کرنے کی کوشش کی تھی کہ یہ حرکت مصنوعی طور پر نہیں کی گئی،میچ ریفری کے فیصلے کا احترام کرتے ہوئے اسے قبول کرتا ہوں،کبھی ایسی کسی سرگرمی میں ملوث ہوں گا اور نہ ہی کسی ساتھی کھلاڑی کو کھیل کی ساکھ کو نقصان پہنچانے دوں گا۔

دوسری جانب سہیل خان اور اظہر علی کو میچ کے دوران تلخ جملوں کا تبادلہ کرنے پر تنبیہ جاری کردی گئی، سہیل خان کو میچ میں وقت ضائع کرنے سے متعلق پی سی بی کوڈ آف کنڈکٹ کے آرٹیکل 2.10 کے لیول 1 جرم کا مرتکب پایا گیا، اظہر علی کو کھلاڑی یا سپورٹ اسٹاف کی سمت خطرناک انداز میں گیند پھینکنے سے متعلق پی سی بی کوڈ آف کنڈکٹ کے آرٹیکل 2.9 کے لیول 1 جرم کا مرتکب پایا گیا۔

کھیل اور سیاست کو الگ الگ رکھنا چاہیے، کپتان ویمنز کرکٹ ٹیم

لاہور: پاکستان ویمنز کرکٹ ٹیم کی کپتان بسمہ معروف کا کہنا ہے کہ بدقسمتی سے کھیل میں سیاست آگئی ہے تاہم کھیلوں کو سیاست سے الگ رکھنا چاہیے۔

پاکستان اور بنگلا دیش کی ویمنز کرکٹ ٹیموں کی ون ڈے سیریز کی ٹرافی رونمائی کے موقع پر قذافی اسٹیڈیم لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے قومی ویمنز کرکٹ ٹیم کی کپتان بسمہ معروف کا کہنا تھا کہ ٹی ٹوئنٹی سیریز کے بعد ایک روزہ سیریز بھی اپنے نام کرنے کے لیے پر امید ہیں، ٹارگٹ ون ڈے سیریز جیتنا ہے جس کے لیے 3 تبدیلیاں کی ہیں، فٹنس کی وجہ سے انعم کو ون ڈے ٹیم میں شامل نہیں کیا گیا جب کہ ڈیتھ آورز میں ثنا سمیت ڈیانا بیگ شامل ہیں۔

بسمہ معروف نے کہا کہ بھارت سے سیریز کھیل کر ہم ایک دوسرے کا مقابلہ کرتے ہیں، بھارت کے ساتھ صرف ورلڈ کپ میں میچز ہوتے ہیں، بھارت سے میچز زیادہ ہوں تو دونوں ٹیموں کو فائدہ ہوگا، بدقسمتی سے کھیل میں سیاست آگئی ہے، کھیل اور سیاست کو الگ رکھنا چاہیے۔

آسٹریلوی کنڈیشنز سے ہم آہنگ ہوگئے سیریز میں بھی معیار برقرار رکھیں گے، فخر زمان

لاہور:  قومی کرکٹ کے اوپنر فخر زمان کا کہنا ہے کہ آسٹریلوی کنڈیشنز سے ہم آہنگ ہو گئے۔

کرکٹ آسٹریلیا الیون کے خلاف وارم اپ میچ میں فتح کے بعد ایک انٹرویو میں فخر زمان کا کہنا تھا کہ سڈنی میں آمد کے بعد یہاں نیٹ میں خاصی محنت کی ہے، یہاں کی پچز مختلف ہیں لیکن  کافی حد تک کنڈیشنز کو سمجھ چکے ہیں، پریکٹس میچ میں بولرز نے اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے میزبان ٹیم کو بڑا سکور نہیں کرنے دیا۔

انہوں نے کہا کہ آسٹریلیا کے خلاف ٹی ٹوئنٹی سیریز میں بھی اچھی کرکٹ دیکھنے کو ملے گی، میزبان کینگروز کا ڈٹ کر مقابلہ کریں گے، پیسرز اور اسپنرز سب ردھم میں نظر آئے، ہدف بڑا نہ ہونے کی وجہ سے بطور اوپنر مجھے اور بابر اعظم کو  بھی کریز پر سیٹ ہونے کا وقت ملا، کارکردگی کا یہی معیار آسٹریلیا کے خلاف ٹی ٹوئنٹی سیریز میں بھی برقرار رکھنے کی کوشش کریں گے۔

Google Analytics Alternative