کھیل

ورلڈ کپ 2019: میچ آفیشلز کا اعلان، پاکستان کے علیم ڈار بھی شامل

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل نے ورلڈ کپ 2019 کے لیے 16 امپائرز اور 6 میچ ریفریز کا اعلان کردیا، جس میں پاکستانی امپائرز علیم ڈار بھی شامل ہیں۔

آئندہ ماہ کے آخر میں انگلینڈ اور ویلز میں شروع ہونے والے عالمی کپ کے لیے ان 22 آفیشلز کا انتخاب کیا گیا ہے جو 30 مئی سے 14 جولائی تک دنیائے کرکٹ کی 10 بہترین ٹیموں کے میچز میں فرائض انجام دیں گے۔

واضح رہے کہ علیم ڈار مزید دو ون ڈے میچوں میں امپائرنگ کے فرائض انجام دینے کے بعد 200 میچوں میں نمائندگی کرنے والے دنیا کے تیسرے امپائر بن جائیں گے۔

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کا کہنا تھا کہ اوول کے میدان میں انگلینڈ اور جنوبی افریقہ کے درمیان افتتاحی میچ میں ڈیوڈ بون میچ ریفری ہوں گے جبکہ کمار دھرماسینا دو فیلڈ امپائرز میں سے ایک ہوں گے اور پال رائفل تھرڈ امپائر کے طور پر فرائض نبھائیں گے۔

ڈیوڈ بون آسٹریلیا کی اس ٹیم میں شامل تھے جس نے ایلن بورڈر کی قیادت میں 1987 میں پہلی مرتبہ عالمی کپ کا ٹائٹل جیتا تھا، اسی طرح کمار دھرماسینا 1996 کی ارجنا رانا ٹنگا کی چیمپئن ٹیم کا حصہ تھے جبکہ پال رائفل 1999 میں اسٹیووا کی قیادت میں ولڈ کپ جیتنے والی ٹیم میں شامل تھے۔

آئی سی سی کی جانب سے آفیشلز میں ایان گولڈ کا نام بھی شامل کیا گیا ہے جو 1983 ورلڈ کپ میں انگلینڈ کے وکٹ کیپر تھے، انہوں نے اعلان کیا ہے کہ وہ اس ٹورنامنٹ کے بعد ریٹائر ہوجائیں گے۔

ایان گولڈ 74 ٹیسٹ میچز، 135 ایک روزہ میچز اور 37 ٹی ٹوئنٹی بین الاقوامی میچوں میں فرائض انجام دے چکے ہیں۔

عالمی کپ کے امپائرز میں پاکستان کے علیم ڈار بھی شامل ہیں، جو پانچویں مرتبہ ورلڈ کپ میں فرائض انجام دیں گے۔

ورلڈ کپ آفیشلز

میچ ریفریز: کرس بروڈ، ڈیوڈ بوون، اینڈے پےکروفٹ، جیف کرو، رنجن مدوگالے، ریچی رچرڈسن۔

امپائرز: علیم ڈار، کمار دھرماسینا، ماریس ایرسمس، کرس گافانے، این گولڈ، رچرڈ النگ ورتھ، رچرڈ کیٹل بارو، نائگل لونگ، بروس اوکسن فورڈ، سندارام روی، پال رائفل، روڈ ٹکر، جوئل ولسن، مائیکل گوف، روچیرا پالیاگورو اور پال ولسن

عمران خان آل ٹائم ورلڈکپ بیسٹ الیون کے کپتان مقرر

آل ٹائم ورلڈکپ بیسٹ الیون میں پاکستان سے عمران خان اور وسیم اکرم کو منتخب کیا گیا ہے۔

ورلڈکپ کا آغاز 30 مئی سے انگلینڈ اینڈویلز کے 11 مختلف مقامات پر ہورہا ہے، کرکٹ کی ایک ویب سائٹ نے اب تک ہونے والے تمام ورلڈکپ کو سامنے رکھتے ہوئے ایک آل ٹائم بیسٹ الیون کا انتخاب کیا ہے، اس میں 1992 ورلڈکپ کی فاتح ٹیم کے کپتان عمران خان کے ساتھ پاکستان سے وسیم اکرم کو متفقہ طورپر لیا گیا ہے۔

اس ورلڈ بیسٹ ٹیم میں آسٹریلیا سے 4، سری لنکا اور پاکستان کے 2،2 ، جنوبی افریقہ، بھارت اور ویسٹ انڈیز سے ایک ایک کھلاڑی کو ٹیم میں منتخب کیا گیا ہے۔ ٹیم کی قیادت عمران خان کریں گے جب کہ دوسرے کھلاڑیوں میں آسٹریلیا سے وکٹ کیپر بیٹسمین ایڈم گلکرسٹ، رکنی پونٹنگ، شین وارن، گلین میگراتھ ، سری لنکا کے کمار سنگاکارا، مرلی دھرن ، بھارت سے سچن ٹنڈولکر، ویسٹ انڈیز کے ویوین رچرڈز، جنوبی افریقہ کے لانس کلوزنر اور پاکستان سے وسیم اکرم شامل ہیں۔

ماہر نفسیات کا پلیئرزکی ذہنی پختگی پر کام شروع

ماہر نفسیات نے انگلینڈ میں بھی کھلاڑیوں کی ذہنی پختگی پر کام شروع کر دیا، تیمور علی خان کو سیشنز کے ساڑھے چار ہزار ڈالرز ادا کیے جائیں گے، وہ لندن میں پاکستانی ٹیم کے ساتھ ہی قیام پذیر ہیں۔

تفصیلات کے مطابق انگلینڈ میں ماہر نفسیات تیمور علی خان نے پاکستانی اسکواڈ کو جوائن کر لیا ہے، بدھ کو ٹریننگ سیشن کے دوران بھی وہ کھلاڑیوں کے ساتھ رہے، ذرائع نے بتایا کہ  انگلینڈ میں ہی رہائش پذیر تیمور منگل کی شب ٹیم ہوٹل پہنچے، وہ انگلینڈ سے سیریز کے دوران پلیئرز کے ہمراہ ہی رہیں گے،اگر اس دوران ان کی کام سے مینجمنٹ متاثر ہوئی تو ورلڈکپ کیلیے بھی روک لیا جائے گا، گذشتہ روز کاؤنٹی گراؤنڈ کینٹ میں تیمور کرکٹرز کو ٹریننگ کرتے دیکھتے رہے، اس دوران انھوں نے  ذہنی پختگی کے حوالے سے مشورے بھی دیے، آئندہ چند روز میں وہ کھلاڑیوں کے ساتھ انفرادی سیشنزکریں گے،  واضح رہے کہ اسلام آباد کی نمائندگی کرنے والے سابق فرسٹ کلاس کرکٹر تیمور علی خان قومی ٹیم کے بولنگ کوچ اظہر محمود کے قریبی دوست ہیں۔

ایم ڈی پی سی بی وسیم خان کی طرح ان کا تعلق بھی برطانیہ سے ہی ہے، ان کی اہلیہ ایک پاکستانی  اسٹار کرکٹر کی ایجنٹ ہیں، اس جوڑی کی ایک ٹریول ایجنسی بھی ہے۔ ذرائع نے مزید بتایا کہ کرکٹ بورڈ انگلینڈ سے سیریز میں بھی تیمور علی خان کو ساڑھے چار ہزار ڈالر ہی معاوضہ دے گا، اس سے قبل یو اے ای میں آسٹریلیا سے میچز کے دوران بھی انھیں اتنی ہی رقم ملی، البتہ مشوروں کا کھلاڑیوں نے خاطرخواہ اثر نہیں لیا اور ٹیم پانچوں ون ڈے میچز ہار گئی تھی، بورڈ حکام کا خیال ہے کہ ورلڈکپ سے قبل ماہر نفسیات کے سیشنز ٹیم کو مدد فراہم کریں گے، پلیئرز کا اپنی صلاحیتیوں پر اعتماد بڑھے گا جبکہ وہ حریف پلیئرز سے مرعوب ہوئے بغیر اپنی بہترین کارکردگی دکھا سکیں گے۔

انٹرنیشنل اسٹارز نے ورلڈ کپ کے لیے سامان باندھنا شروع کردیا

نئی دہلی:  آئی پی ایل میں شریک انٹرنیشنل اسٹارز نے ورلڈ کپ میں شرکت کیلیے اپنا سامان باندھنا شروع کردیا میگا ایونٹ کیلیے منتخب ہونے والے پلیئرز اپنی اپنی ٹیموں کو بیچ منجھدار میں چھوڑ کر نیشنل ڈیوٹی پر لوٹنے والے ہیں۔

سب سے پہلے رخصت ہونے والوں میں جونی بیئر اسٹو شامل ہیں جو سن رائزرز حیدرآباد کی جانب سے اپنے اس سیزن کے آخری میچ میں صفر پر آؤٹ ہوئے،اس سے قبل 9 اننگز میں وہ 445 رنز بناکر نمایاں رہے۔

حیدرآباد کے ایک اور بیٹسمین ڈیوڈ وارنر آئندہ ہفتے آسٹریلوی ٹیم کو جوائن کریں گے۔ ماہرین کا خیال ہے کہ انٹرنیشنل اسٹارز کے آخری اسٹیج پر رخصت ہونے سے آئی پی ایل کی چمک دمک ماند پڑسکتی ہے۔

ورلڈ کپ کے لیے بہترین ٹیم کا انتخاب کیا گیا، چیئرمین پی سی بی

 اسلام آباد: چیئرمین پاکستان کرکٹ بورڈ احسان مانی کا کہنا ہے کہ کرکٹ ورلڈ کپ کے لیے بہترین ٹیم کا انتخاب کیا گیا ہے، ٹیم جیت کے لئے پرعزم ہے۔

پارلیمنٹ ہاؤس میں اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر سے پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئر مین احسان مانی نے ملاقات کی، ملاقات میں بین الپارلیمانی کرکٹ ٹورنامنٹ اور کرکٹ ورلڈ کپ سمیت باہمی دلچسپی کے دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

اس موقع پر چیئرمین پاکستان کرکٹ بورڈ احسان مانی کا کہنا تھا کہ کرکٹ ورلڈ کپ کے لیے بہترین ٹیم کا انتخاب کیا گیا ہے، پاکستانی ٹیم کرکٹ ورلڈ کپ جیتنے کے لیے پُرعزم ہے۔

اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے ورلڈ کپ میں پاکستان کرکٹ ٹیم کی کامیابی کے لیے نیک خواہشات کا اظہارکرتے ہوئے کہا کہ موجودہ حکومت کرکٹ سمیت ملک میں کھیلوں کے فروغ کے لیے ترجیحی بنیادوں پر اقدامات اٹھا رہی ہے، بین الپارلیمانی کرکٹ ٹورنامنٹ سے کرکٹ ڈپلومیسی کو فروغ حاصل ہوگا اور ٹورنامنٹ میں حصہ لینے والے ممالک کے اراکین پارلیمنٹ کو ایک دوسرے کے قریب لانے میں مدد ملے گی۔ اسپیکر نے بین الپارلیمانی کرکٹ ٹورنامنٹ میں شرکت کرنے والی اراکینِ پارلیمنٹ کی ٹیم کے لیے تربیتی کیمپ کے انعقاد میں پی سی بی کے تعاون کو سراہا۔

شاداب خان علاج کے لیے لندن روانہ، جمعے کو ڈاکٹر چیک اپ کریں گے

 لاہور: وائرس کی نشاند ہی پر ٹیم سے ڈراپ کیے جانے والے کرکٹر شاداب خان علاج کے لیے لندن روانہ ہوگئے۔

قومی کرکٹر شاداب خان علاج کے لیے لندن روانہ ہوگئے ہیں جہاں جمعے کو لندن کے ڈاکٹر پیٹرک کینڈی شاداب خان کا چیک اپ کریں گے، ٹریننگ کیمپ کے آخری روز شاداب خان کی بلڈ ٹیسٹ رپورٹ میں وائرس کا انکشاف ہوا تھا جس پر انہیں انگلینڈ کے خلاف سیریز سے ڈراپ کردیا گیا تھا۔

ورلڈکپ میں شاداب خان کی شمولیت یقینی بنانے کے لیے پی سی بی ان کی جلد ریکوری اور فٹنس کے لیے تمام وسائل کو یقینی بنانے کے لیے کوشاں ہے۔

واضح رہے کہ رپورٹ میں وائرس کی نشاندہی پر شاداب خان کو انگلینڈ کےخلاف سیریز سے ڈراپ کرکے یاسر شاہ کو اسکواڈ کا حصہ بنایاگیا ہے۔

ورلڈکپ کا ٹائٹل اپنے نام کرنے کا عزم لیے قومی ٹیم انگلینڈ پہنچ گئی

لندن: ورلڈکپ کا ٹائٹل اپنے نام کرنے کا عزم لیے پاکستان کرکٹ ٹیم سرفراز احمد کی قیادت میں انگلینڈ پہنچ گئی۔

آئندہ ماہ انگلینڈ میں شیڈول ورلڈ کپ کے لیے پاکستانی ٹیم لاہور سے بیرون ملک روانہ ہو گئی، قومی ٹیم سرفراز احمد کی قیادت میں انگلینڈ کے خلاف 5 ون ڈے اور ایک ٹی ٹوئنٹی میچ کھیلے گی۔

پاکستان کرکٹ ٹیم 27 اپریل کو کینٹ کائونٹی کے خلاف میچ سے دورے کا آغازکرے گی، 3 پریکٹس میچزکے بعد 5 مئی کو انگلینڈ کیخلاف ٹی ٹوئنٹی میچ کھیلا جائے گا، پھر 5 ون ڈے میچزکی سیریز ہوگی۔ ورلڈ کپ مقابلوں کا آغاز 30 مئی سے ہوگا جب کہ ہر ٹیم سیمی فائنل سے پہلے 9، 9 میچ کھیلے گی۔

اس سے قبل قذافی اسٹیڈیم میں مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کپتان سرفراز احمد نے کہا کہ ورلڈ کپ میں ہماری تیاری مکمل ہے اور دورہ انگلینڈ کے دوران ورلڈ کپ کی تیاری کا مزید موقع ملے گا میں قوم کو یقین دلاتا ہوں کہ ورلڈ کپ کا ہر کھلاڑی گراؤنڈ میں 100فیصد پرفارمنس دکھانے کی پوری کوشش کرے گا۔

سرفراز احمد نے کہا کہ قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان اور وزیر اعظم عمران خان نے پوری ٹیم کو وزیر اعظم ہاؤس بلا کر بہت عزت دی ہے جس پر ہم سب ان کے مشکور ہیں، وزیر اعظم کے مدعو کرنے سے ٹیم کی حوصلہ افزائی ہوئی ہے اور ان کا مورال بلند ہوا ہے، وزیر اعظم نے ٹیم کو بھرپور سپورٹ کیا اور کہا کہ نتائج جو بھی ہو ہار جیت کا خوف نکال کردلیری سے کھیلو، ہم آپ کو بھرپور سپورٹ کریں گے۔ سرفراز احمد نے کہاکہ بطور کپتان میری بھی خواہش ہے کہ عمران خان کی طرح ورلڈ کپ جیتوں اور ملک کا نام روشن کروں۔

واضح رہے کہ شاداب خان کی بیماری کی وجہ سے یاسرشاہ کوٹیم میں شامل کیاگیا ہے جبکہ محمد عامر اور آصف علی کے لیے بھی انگلینڈ کی سیریزنہایت اہم ہوگی۔

انڈر19 ٹیم کی سیکورٹی کلیئرنس کیلیے پی سی بی کا سری لنکن بورڈ سے رابطہ

لاہور: قومی انڈر 19 ٹیم کے رواں ماہ شروع ہونے والے دورے سے قبل سیکیورٹی صورتحال کے حوالے سے پی سی بی کی جانب سے سری لنکن بورڈ کو ای میل بھجوائی گئی ہے۔ 

پی سی بی ذرائع کے مطابق قومی انڈر 19 کرکٹرز معمول کے مطابق سری لنکا کے خلاف سیریز کی تیاریاں جاری رکھے ہوئے ہیں، شیڈول کے مطابق پاکستان انڈر 19 ٹیم 30 اپریل کو سری لنکا روانہ ہوگی، وہاں میزبان ٹیم کے ساتھ 2 چار روزہ اور 3 ایک روزہ میچز ہوں گے۔

پی سی بی نے قومی انڈر19 ٹیم کے دورہ سری لنکا کو میزبان بورڈ اور حکومت کی سیکیورٹی کلیئرنس سے مشروط قرار دیا تھا، دورے سے قبل سیکیورٹی صورتحال کے حوالے سے پی سی بی کی جانب سے سری لنکن بورڈ کو ای میل بھجوائی گئی ہے، سری لنکا کی طرف سے گرین سگنل ملنے پر کھلاڑیوں کو روانہ کیا جائے گا۔

یاد رہے کہ اتوار کو سری لنکا میں دہشت گردی کے نتیجے میں 300 شہری ہلاک اور 500 زخمی ہوئے تھے۔

 

Google Analytics Alternative