کھیل

ڈوپنگ کے سبب سیرا ایرانی کی سزا میں 8ماہ کی توسیع

لوزان: کھیلوں کی عالمی ثالثی عدالت (سی اے ایس) نے ڈوپ ٹیسٹ میں ناکامی کے باعث اٹالین ٹینس اسٹار سیرا ایرانی کی معطلی کی سزا 2 سے بڑھا کر 10 ماہ کر دی جس سے ان کے مستقبل پر بھی سوالیہ نشان لگ گیا ہے۔

گزشتہ سال فروری میں سیرا ایرانی کا ڈوپ ٹیسٹ مثبت آیا تھا جہاں وہ ممنوعہ دوا لیٹروزول استعمال کرنے کی مرتکب ٹھہری تھیں۔

انٹرنیشنل ٹینس فیڈریشن (آئی ٹی ایف) نے ابتدائی طور پر ان پر دو ماہ کی پابندی عائد کی تھی جس پر اٹالین ٹینس فیڈریشن نے کھیلوں کی عالمی ثالثی عدالت میں ان کی سزا بڑھانے کی اپیل کی تھی تاہم دوسری جانب سیرا ایرانی نے بھی سزا ختم کرنے کی اپیل کی تھی۔

کھیلوں کی عالمی ثالثی عدالت نے سیرا کی معطلی کی سزا بڑھا کر 10 ماہ کرتے ہوئے کہا کہ ہم تسلیم کرتے ہیں یہ دوا سیرانی کی والدہ استعمال کرتی ہیں لیکن تھوڑی غلطی سیرا کی بھی ہے جس کی وجہ سے ان کی سزا 2 سے بڑھا کر 10 ماہ کی گئی ہے۔

سیرا نے اپنے بیان میں کہا کہ سی اے ایس کی جانب سے سزا میں اضافے سے انہیں بے حد مایوسی ہوئی اور انہوں نے اسے اپنے ساتھ غیر منصفانہ سلوک قرار دے دیا۔

جس وقت سیرا پر پابندی عائد کی گئی تھی ان کی عالمی رینکنگ 4 تھی اور اس وقت وہ عالمی درجہ بندی میں 72ویں نمبر پو موجود ہیں اور اس کی وجہ سے ان کے عالمی ٹینس میں مستقبل پر سوالیہ نشان لگ گیا ہے۔

2012 کے فرنچ اوپن کا فائنل کھیلنے والی اسٹار نے کہا کہ میں نے اپنی پوری زندگی اس کھیل کو دی اور میں اس بدترین سلوک کی مستحق ہرگز نہیں ہوں۔

انہوں نے کہا کہ میں نے پابندی اور دوبارہ کھیل شروع کرنے کے دوران 7ماہ کی پابندی بھگتی اور دوبارہ 280ویں عالمی رینکنگ سے کھیل کا آغاز کیا اور اب مجھ پر دوبارہ 8ماہ کی اضافی پابندی عائد کردی گئی ہے جو بالکل عقل سے بالاتر ہے۔

ٹیسٹ کرکٹرز پی ایس ایل سے نہ ڈھونڈیں، وقار یونس کا مشورہ

لاہور: سابق کپتان وقار یونس نے پی سی بی کو مشورہ دیا ہے کہ ٹیسٹ کرکٹرز پی ایس ایل سے نہ ڈھونڈے جائیں، ان کے مطابق ڈومیسٹک مقابلوں پر بھی توجہ دینا چاہیے۔

ایک انٹرویو میں وقار یونس نے کہاکہ نیا ٹیلنٹ سامنے لانے کے حوالے سے پی ایس ایل کو سراہا جا سکتا ہے، ایونٹ سے پاکستان کو دلیری کے ساتھ کھیلنے والے کرکٹرز شاداب خان، حسن علی اور فہیم اشرف بھی ملے، البتہ  ٹیسٹ پلیئرز تیار کرنے کیلیے ڈومیسٹک کرکٹ کی بھی قدر کرنا چاہیے، سہولیات کا معیار کئی دیگر ملکوں سے کم ہونے کے باوجود گذشتہ 70سال میں پاکستان کو زیادہ ٹیلنٹ یہیں سے حاصل ہوا،اس پر توجہ دی جائے تو مزید بہتر نتائج حاصل کیے جاسکتے ہیں۔

ایک سوال پر انھوں نے کہا کہ ٹیسٹ ٹیم میں  ناتجربہ کار کھلاڑیوں اور آل راؤنڈرز پر مشتمل کمبی نیشن ہونے کی وجہ سے نمبر 6پر سرفراز احمد کی کارکردگی بہت اہمیت رکھتی ہے،کپتان بطور بیٹسمین محدود اوورز کی کرکٹ میں تو اچھا پرفارم کررہے ہیں لیکن ٹیسٹ میچز میں توقعات پر پورا نہیں اتر رہے،فی الحال تینوں فارمیٹ کیلیے وہی مووزوں ہیں لیکن ان کا متبادل بھی نظروں میں رکھنے اور گروم کرنے میں کوئی خرابی نہیں۔

وقار یونس نے کہا کہ شاہین شاہ آفریدی بہت کم عمری میں انٹرنیشنل کرکٹ کا بوجھ اٹھا رہے ہیں،پیسر کو محتاط انداز میں آزمانا چاہیے،بہتر ہوتا کہ انھیں پہلے سینئر کرکٹ کیلیے گروم کیا جاتا۔انھوں نے کہا کہ پاکستان کرکٹ کے بہتر مستقبل کیلیے ضروری ہے کہ نہ صرف بڑے شہروں بلکہ دور دراز کے علاقوں سے بھی نیا ٹیلنٹ سامنے آتا رہے،مجھ سمیت مشتاق احمد اور محمد عرفان بھی پسماندہ علاقوں سے ہی سامنے آئے تھے۔

فٹبال ورلڈ کپ، شاہد آفریدی جرمنی کو سپورٹ کریں گے

لاہور: فیفا ورلڈ کپ میں شاہد آفریدی جرمنی کو سپورٹ کریں گے۔

کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شاہد آفریدی نے کہا کہ فٹبال مجھے بہت پسند ہے، شروع سے ہی میری فیورٹ ٹیم جرمنی ہے، اس مرتبہ بھی جرمنی کو سپورٹ کروں گا، الوداعی میچ اپنی سرزمین پر نہیں کھیل سکا لیکن ویسٹ انڈیز کے خلاف آخری میچ میں عالمی الیون کی قیادت کرنا میرے لیے اعزاز رہا۔

شاہد آفریدی کا کہنا تھا کہ اب زندگی میں کوئی حسرت نہیں، جو چاہا ملا، اب اپنے فلاحی مقاصد پر توجہ ہے۔ پاکستان ٹیم کی کارکردگی کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ قومی ٹیم بہتری کی طرف جا رہی ہے، ٹی ٹوئنٹی کرکٹ نے سب کچھ بدل کر رکھ دیا ہے، ان مقابلوں کوئی بھی ٹیم کچھ بھی کرسکتی ہے۔

شوٹنگ بال سیریز؛ پاکستان، بھارت اور یو اے ای شریک

کراچی: پاکستان، بھارت اور متحدہ عرب امارات کے مابین 3 ملکی شوٹنگ بال سیریز کا انعقاد کیا جائے گا۔

اطلاعات کے مطابق یہ بات پاکستان شوٹنگ بال فیڈریشن کے سیکریٹری سید مدد علی شاہ نے بھارت اور نیپال کے مابین شوٹنگ بال سیریز کے موقع پر اپنے خطاب میں کہی، انھوں نے کہا کہ ایشن شوٹنگ بال فیڈریشن نے سیریز کے لیے پاکستان کو گرین سگنل دے دیا ہے۔

بھارت اور نیپال کے مابین سیریز کا انعقاد ایشین شوٹنگ بال فیڈریشن کی اجازت سے نیپال میں کیا گیا تھا، سیریز بھارت نے 2-0 سے جیت لی، سینئر بوائز شوٹنگ بال سیریز میں بھارت نے نیپال کو 15-5 اور15-8 سے شکست دی جبکہ سینئر گرلز شوٹنگ بال سیریز میں بھارت نے نیپال کو 15-6 اور 15-2 سے شکست دے کر سیریز اپنے نام کرلی۔

مہمان خصوصی جنرل سیکریٹری ایشین شوٹنگ بال فیڈریشن راوندرا تمارا نے سیریز کی فاتح ٹرافی بھارت کے کپتان کو پیش کی۔

سیریز کے اختتام پر مہمان خصوصی جنرل سیکریٹری ایشین شوٹنگ بال فیڈریشن راوندرا تمارا نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میری خواہش ہے کہ متحدہ عرب امارات میں جلد ہی پاکستان، بھارت اور متحدہ عرب امارات کے درمیان 3 ملکی سیریز کا انعقاد کیا جائے جس کے لیے ہم نے کام کا آغاز کردیا ہے۔

اس موقع پر سندھ شوٹنگ بال ایسوسی ایشن کے سیکریٹری ڈاکٹر قیصر جتویٰ بلوچستان شوٹنگ بال ایسوسی ایشن کے سیکریٹری عبدالکریم لونی، خالد بروہی اور اعجاز احمد نے ایشین شوٹنگ بال فیڈریشن کے جنرل سیکریٹری راوندرا تمارا کو سیریز کے کامیاب انعقاد پر مبارک باد پیش کی۔

 

اسکاٹ لینڈ کے ہاتھوں انگلینڈ کو تاریخی شکست

اسکاٹ لینڈ نے ایک میچ پر مشتمل ون ڈے سیریز میں انگلینڈ کو سنسنی خیز مقابلے کے بعد 6 رنز سے شکست دے کر تاریخ رقم کر دی۔

اسکاٹ لینڈ کے شہر ایڈنبرا میں کھیلے گئے ایک روزہ میچ میں انگلینڈ نے ٹاس جیت کر میزبان ٹیم کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی۔

اسکاٹ لینڈ کی جانب سے کراس اور کپتان کوئٹزر نے جارحانہ آغاز کرتے ہوئے ابتدائی 13 اوورز میں ٹیم سنچری مکمل کردی اور مقررہ 50 اوورز میں رنز کا پہاڑ کھڑا کردیا۔

کپتان کوئٹزر 58 رنز بنا کر آوٹ ہونے والے پہلے بلے باز تھے جس کے بعد 107 کے اسکور پر کراس 48 رنز بنا کر آوٹ ہوئے۔

اوپنرز کے آوٹ ہونے کے بعد کیلم میکلیوڈ نے بیرنگٹن کے ساتھ مل کر اسکور کو 200 رنز تک پہنچایا تاہم بیرنگٹن 39 رنز بنا کر آوٹ ہوئے جس کے بعد جارج میونسی نے ان کا بھر پور ساتھ دیتے ہوئے اپنی نصف سنچری مکمل کی۔

میونسی 55 رنز بنا کر آوٹ ہوئے جس کے بعد ڈی ای بج 11 رنز کا اضافہ کرکے پویلین لوٹ گئے۔

اسکاٹ لینڈ نے مقررہ اوورز میں 5 وکٹوں پر 371 رنز بنالیے۔

کیلم میکلوڈ نے 140 رنز بنا کر ناقابل شکست رہے۔

انگلینڈ کی جانب سے عادل رشید اور لیام پلنکیٹ نے 2،2 وکٹیں حاصل کیں۔

ایک بڑے ہدف کے تعاقب میں تجربہ کار انگلینڈ کی ٹیم کا آغاز بھی انتہائی جارحانہ تھا، جیسن روئے اور جونی بیئراسٹو نے 129 رنز کی شراکت قائم کی۔

انگلینڈ کو پہلا نقصان 34 رنز بنانے والے جیسن روئے کی صورت میں اٹھانا پڑا جس کے بعد الیکس ہیلز نے 52 رنز کی اننگز کھیلی۔

جونی بیئراسٹو نے کیرئر کی مسلسل تیسری سنچری داغ کر انگلینڈ کے لیے اعزاز حاصل کیا اور صرف 59 گیندوں میں 12 چوکوں اور 6 چھکوں کی مدد سے 105 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے۔

جونی بیرسٹو کے آوٹ ہوتے ہی انگلینڈ کی وکٹیں وقفے وقفے سےگرتی رہیں اور ہدف حاصل کرنے سے قبل ہی پوری ٹیم آوٹ ہوگئی۔

معین علی اور لیام پلنکٹ بالترتیب 46 اور 47 رنز بنا کر ٹیم کو ہدف کے قریب لائے لیکن ان کی یہ کوششیں ناکافی ثابت ہوئیں۔

انگلینڈ کی پوری ٹیم 365 رنز پر آوٹ ہوئی اور یوں 6 رنز سے اپ سیٹ شکست کا سامنا کرنا پڑا۔

اسکاٹ لینڈ کی جانب سے مارک ویٹ نے سب سے زیادہ 3 وکٹیں حاصل کیں۔

خیال رہے کہ اسکاٹ لینڈ اور پاکستان کے درمیان ٹی ٹوئنٹی میچوں پر مشتمل سیریز کھیلی جائےگی جس کا آغاز 12 جون سے ہوگا۔

بنگلہ دیش پہلی مرتبہ ویمن ایشین چیمپیئن بن گیا

کوالالمپور: بنگلہ دیش نے فائنل میں اعصاب شکن مقاملے کے بعد بھارت کو 3 وکٹوں سے شکست دے کر ویمن ایشین ٹی ٹوئنٹی کپ 2018 جیت لیا۔

بنگلہ دیش ویمن ٹیم نے ٹاس جیت کر فیلڈنگ کا فیصلہ کیا اور عمدہ باؤلنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے بھارت کو مقررہ 20 اوورز میں 112 رنز تک محدود کیا۔

بھارت کی جانب سے کپتان ہرمن پریت کور نے 42 گیندوں پر 56 رنز کی اننگز کھیلی جبکہ دیگر کھلاڑیوں میں میتھالی راج اور کرشنا مورتی 11،11 رنز بنا کر نمایاں رہیں۔

بنگلہ دیشی باؤلرز میں خدیجۃالکبریٰ اور رومانہ احمد نے 2، 2 بھارتی کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

جواب میں 6 مرتبہ کی ایشین چیمپیئن بھارتی ویمن ٹیم نے بھی بہتر باؤلنگ کا مظاہرہ کیا تاہم بنگلہ دیشی خواتین نے میچ کی آخری گیند پر مطلوبہ ہدف حاصل کرکے بھارت سے ایشین چیمپیئن کا تاج چھین لیا۔

بنگلہ دیش کی جانب سے نگار سلطانہ 27 اور رومانہ احمد 24 رنز بنا کر نمایاں رہیں، جبکہ بھارت کی جانب سے پونم یادیو نے 4 بنگلہ دیشی کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

یاد رہے کہ ٹورنامنٹ میں بھارت اور بنگلہ دیش کے ہاتھوں شکست کے بعد پاکستانی ویمن ٹیم ایونٹ سے باہر ہوگئی تھی اور بنگلہ دیشی ٹیم نے پہلی مرتبہ ایونٹ کا فائنل کھیلنے کا اعزازا حاصل کیا تھا۔

خیال رہے کہ گزشتہ تمام ایشین چیمپیئن شپ کا تاج اپنے سر پر سجانے والی بھارتی ویمن ٹیم کو پہلی مرتبہ فائنل میں شکست کا سامنا کرنا پڑا۔

واضح رہے کہ پاکستان ویمن ٹیم بھی 2 مرتبہ ایشین ویمین چیمپیئن شپ کا فائنل کھیل چکی ہے،اور دونوں ہی مرتبہ بدقسمتی سے اسے شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

رافیل نڈال ریکارڈ 11 ویں مرتبہ فرنچ اوپن کے چمپین بن گئے

اسپین کے ٹینس اسٹار رافیل نڈال نے فرنچ اوپن کے فائنل میں ڈومینیک تھیم کو شکست دے کر ریکارڈ 11 ویں مرتبہ چمپیئن بننے کا اعزاز حاصل کرلیا۔

رافیل نڈال نے آسٹریا سے تعلق رکھنے والے نوجوان کھلاڑی ڈومینک تھیم کے خلاف میچ کے اختامی مراحل میں انجری کے باوجود 6-4، 6-3 اور 6-2 سے کامیابی سمیٹ لی۔

عالمی نمبرایک 32 سالہ اسٹار نے اس کامیابی کے ساتھ ہی گرینڈ سلیم ٹائٹلز کی تعداد 17 کردی جو حریف کھلاڑی روجر فیڈرر کے ریکارڈ سے محض تین ٹائٹل پیچھے ہیں۔

رافیل نڈال نے فرنچ اوپن کے فائنل میں مشکلات کے باوجود اعصاب کو قابو میں رکھتے ہوئے بہترین کھیل کا مظاہرہ کیا جبکہ انھیں چوتھے گیم میں انگلی کی انجری کا سامنا کرنا پڑا تھا اور ڈاکٹر کی مدد لینا پڑی تھی تاہم انھوں نے میچ کو جاری رکھا اور مسلسل دوسرے سال چمپین بن کر ریکارڈ 11 مرتبہ فرنچ اوپن جیتنے کا اعزاز اپنے نام کیا۔

خیال رہے کہ رافیل نڈال نے 2005 میں 20 برس کی عمر میں پہلی مرتبہ فرنچ اوپن چمپیئن بننے کا اعزاز پایا تھا جس کے بعد وہ مسلسل 2008 تک چمپین رہے تاہم 2009 میں روجر فیڈرر نے ان سے یہ اعزاز چھین لیا۔

کنگ آف کلے کے نام سے مشہور رافیل نڈال نے 2010 میں دوبارہ ٹائٹل اپنے نام کیا اور 2014 تک مسلسل چمپین رہے لیکن 2015 اور 2016 میں اسٹئین واورینکا اور نوواک جوکووچ نے کامیابی سمیٹی جس کے بعد 2017 کے ٹورنامنٹ میں نڈال نے فائنل میں واورینکا کو شکست دے کر جیت کے ٹوٹے ہوئے سلسلے کو بحال کیا اور 2018 میں اس کا کامیابی سے دفاع کیا۔

چیمپئنز ٹرافی؛ قومی ہاکی ٹیم نے خطرناک عزائم ظاہر کردیے

لاہور: چیمپئنزٹرافی سے قبل پاکستان ہاکی ٹیم نے خطرناک عزائم ظاہر کردیے۔

23جون سے ہالینڈ میں شیڈول چیمپئنزٹرافی ٹورنامنٹ میں شریک تمام ٹیموں کی تیاریاں عروج پر پہنچ گئیں، یورپی کنڈیشنز سے  ہم آہنگی حاصل کرنے کے لیے پاکستان ہاکی ٹیم3 جون سے ہی ہالینڈ کے شہر بریڈا میں موجود ہے اورغیرملکی کوچز کی نگرانی میں بھر پور تیاریوں کا سلسلہ جاری رکھے ہوئے ہے۔

گزشتہ روز پاکستان کا پہلا پریکٹس میچ  ہالینڈ کے لیڈن ہاکی کلب کے خلاف شیڈول تھا جس میں گرین شرٹس نے حریف سائیڈ کو چاروں شانے چت کرتے ہوئے صفر کے مقابلے میں 7گول سے میچ کا نتیجہ اپنے نام کیا۔میچ کے دوران پاکستانی  ٹیم مکمل طور پر چھائی رہی اور اس نے میزبان سائیڈ کے خلاف یکے بعد دیگرے گولز کرنے کا سلسلہ جاری رکھا۔

ارسلان قادر بھر پور فارم میں دکھائی دیے انھوں نے گولز کی ہیٹ ٹرک مکمل کر کے گرین شرٹس کی فتح میں اہم کردار ادا کیا۔میچ کے آغاز میں ہی پاکستانی ٹیم نے جارحانہ انداز اپنایا اور پہلے کوارٹر میں 2 گول کرنے میں کامیاب ہو گئی، کھیل کے8 ویں منٹ میں ارسلان قادر نے گرین شرٹس کی طرف سے پہلا گول کیا جسے 12ویں منٹ میں عرفان جونیئر نے ڈبل کردیا، دوسرے کوارٹر میں بھی پاکستانی ٹیم نے عمدہ کھیل کا سلسلہ جاری رکھا اور مزید 2گول بناکرمیچ  پرگرفت مضبوط بنالی۔

پاکستان کی  طرف سے تیسرا گول ارسلان قادر نے22ویں منٹ میں  کیا، 28ویں منٹ میں  کپتان رضوان سینئر نے چوتھا گول بناکرمیزبان سائیڈ کی میچ میں واپسی کے تمام راستے بند کردیے، تیسرے کوارٹر میں پاکستانی ٹیم  مزید ایک گول کرنے میں کامیاب رہی، یہ گول 43ویں منٹ میں  دلبر نے کیا۔چوتھے کوارٹر میں پاکستان نے مزید  2 بار گیند کو جال کے اندر پھینک کر میچ کا نتیجہ اپنے نام کیا، ارسلان قادر نے 52وین منٹ میں نہ صرف گولز کی ہیٹ ٹرک مکمل کی بلکہ پاکستان کی کامیابی کی راہ مزید  ہموار کر دی۔

کھیل ختم ہونے سے3 منٹ قبل پاکستانی ٹیم نے ایک بار پھر عمدہ موو بنائی اور گیند کو حریف سائیڈ کے ڈی ایریا میں لے جانے میں کامیاب ہو گئی، وہاں پر پہلے سے موجود  دلبر نے ساتھی کھلاڑی کے پاس پر انفرادی طور پر دوسرا جبکہ مجموعی طور پر ساتواں گول کر کے پاکستانی ٹیم کی فتح  پر مہر ثبت کی۔

یاد رہے کہ پاکستان ہاکی ٹیم اپنا اگلا پریکٹس میچ ہالینڈ کے خلاف کھیلے گی، دونوں ٹیمیں 11جون کو ایک دوسرے کے خلاف ایکشن میں دکھائی دیں گی۔

Google Analytics Alternative