کھیل

برسبین: پاکستان کے 2 وکٹ پر 70رنز، جیت کیلئے مزید 420 درکار

 

برسبین ٹیسٹ کے تیسرے روز کھیل کے اختتام پر پاکستان نے 2 وکٹ پر 70 رنز بنالیے ہیں،میچ جیتنے کے لیے پاکستان کو 420 رنز درکار ہیں۔

دوسری اننگز میں پاکستان کی 8 وکٹیں باقی ہیں جبکہ اظہر علی 41 اور یونس خان صفر رنز پر کریز پر موجود ہیں، آؤٹ ہونے والے کھلاڑیوں میں سمیع اسلم 15رنز اور بابر اعظم 14کے انفرادی اسکور پر اسمتھ کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔

آسٹریلیا نے دوسری اننگز 5 وکٹو ں پر 202 رنز بنا کر ڈکلیئر کردی تھی اورپاکستان کو جیت کے لیے490 رنز کاہدف دیاتھا۔

اس سے پہلے ڈے نائٹ ٹیسٹ میں آسٹریلیا کے 429رنز کے جواب میں پاکستان کی ٹیم پہلی اننگز میں صرف 142 بناکر آؤٹ ہوگئی تھی، جس کے بعد آسٹریلیا نے پاکستان کو فالوآن نہ کرانے کا فیصلہ کیا تھا۔

آسٹریلیا نے دوسری اننگز میں 202 رنز بنائے اور اس کے5 کھلاڑی آؤٹ ہوئے، جس میں یوٹی خواجہ کے 74رنز، اسمتھ63 رنز اور ہینڈزکومب کے 35رنز ناٹ آؤٹ شامل تھےجبکہ وارنر 12 اور جبکہ رنشا صرف 6 رنز بناکر آؤٹ ہوئے۔

پاکستان ٹیم جیت کے لیے 490کا پہاڑ جیسا بڑا ہدف ملا ، جس کے تعاقب میں اس کے 2 کھلاڑی پویلین لوٹ چکے ہیں،قومی ٹیم مشکلات کا شکار ہے اور اب بھی ٹیسٹ جیتنے کے لیے اسے 420رنز بنانا ہوں گے۔

برسبین ٹیسٹ کا دوسرا دن؛ 97 رنزپرپاکستان کے8 کھلاڑی آؤٹ ہوگئے

برسبین: پاکستان اورآسٹریلیا کے درمیان کھیلے جا رہے پہلے ٹیسٹ کے دوسرے روز کے اختتام پرپاکستانی بیٹنگ لائن مشکلات کا شکار ہے اوراس کے8 کھلاڑی آؤٹ ہوچکے ہیں۔

برسبین کے وولون گابا اسٹیڈیم میں کھیلے جا رہے ڈے اینڈ نائٹ ٹیسٹ میچ کے دوسرے روزکینگروز کے 429 رنز کے جواب میں قومی ٹیم کی بیٹنگ کو شدید مشکالت کا سامنا کرنا پڑا اور اس کے 8 کھلاڑی 97 کےمجموعی اسکور پر آؤٹ ہوچکے ہیں۔ پہلے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی اظہرعلی تھے جو کہ 6 رنز کے مجموعی اسکورپر5 رنزبنا کرآؤٹ ہوئے، انہیں مچل اسٹارک نے آؤٹ کیا جب کہ بابر اعظم  43 کے مجموعی اسکور پر 19 رنز بنا کر ہیزل ووڈ کا شکار بنے ،اگلے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی یونس خان تھے جو کہ پہلی ہی گیند پر بغیرکوئی رنزبنائے آؤٹ ہوگئے جب کہ ان کے بعد کپتان مصباح الحق صرف 4 رنز بناکر پویلین واپس لوٹ گئے۔اسد شفیق بھی زیادہ دیرتک وکٹ پرنہ ٹہرسکے اورصرف 2 رنز بناکراسٹارک کا شکار ہوگئے،56 کے مجموعی اسکورپراوپنرسمیع اسلم بھی ہمت ہارگئے اور 22 رنزبنا کراپنی وکٹ گنوا بیٹھے۔وہاب ریاض اور یاس شاہ بھی ایک ایک رنز بنا کر آؤٹ ہوئے ،اس وقت کریزپرسرفرازاحمد 31 اورمحمد عامر8 رنز بنا کروکٹ پرموجود ہیں۔آسٹریلیا کی جانب سے مچل اسٹارک اورہیزل ووڈ نے تین تین جب کہ برڈ نے2 وکٹیں حاصل کیں۔

اس سے قبل میچ کے دوسرے روزآسٹریلیا کی ٹیم پہلی اننگز میں 429 رنز بناکر آوٹ ہوگئی تھی، دوسرے روز آسٹریلیا نے جب اپنی نامکمل اننگز کا آغاز کیا تو 288 کے مجموعی اسکور میں صرف 35 رنز کا اضافہ کرنے کے بعد کپتان اسٹیو اسمتھ 130 رنز بناکر آؤٹ ہوگئے جب کہ 380 کے مجموعی اسکور پر پیٹر ہینڈس کومب بھی 105 رنز بناکر وہاب ریاض کی گیند پر بولڈ ہوگئے، بعد میں آنے والے کھلاڑیوں میں کوئی بھی خواطر خواہ کارکردگی نہیں دکھاسکا اور پوری ٹیم 429 رنز بناکر آؤٹ ہوگئی۔آسٹریلیا کی جانب سے کپتان اسٹیو اسمتھ نے 130،  ہینڈ کومب نے 105 اور رینشا نے 71 رنز کی شاندار اننگز کھیلی۔

پہلے روز کھیل کے اختتام تک آسٹریلیا نے 3 وکٹوں کے نقصان پر 288 رنز بنائے تھے۔ آسٹریلیا کی جانب سے اننگز کا آغاز ڈیوڈ وارنر اور میٹ رینشا نے کیا، دونوں اوپنر نے ٹیم کو پر اعتماد آغاز فراہم کیا لیکن 32 کے انفرادی اسکور پر ڈیوڈ وارنر محمد عامر کی گیند پر ایل بی ڈبلیو ہو گئےاوراگلے ہی اوور میں یاسر شاہ نے عثمان خواجہ کو 4 کے انفرادی اسکور پر مصباح الحق کے ہاتھوں کیچ آؤٹ کرادیا۔

وہاب ریاض نے رینشا کو 71 رنز پر وکٹوں کے پیچھے کیچ کرایا۔ پہلے روز کا کھیل ختم ہوا تو اسٹیون اسمتھ 110 اور ہینڈ کومب 64 رنز کے ساتھ وکٹ پر موجود ہیں، دونوں کھلاڑیوں کے درمیان 137 رنز کی شراکت قائم ہو چکی ہے۔ پاکستان کی جانب سے محمد عامر اور وہاب ریاض نے 4 جب کہ  یاسر شاہ نے ایک وکٹ حاصل کی۔

برسبین ٹیسٹ :آسٹریلیا429رنز پر آؤٹ

برسبین ٹیسٹ میں آسٹریلیا کی پوری ٹیم پہلی اننگز میں429رنز بناکر آؤٹ ہوگئی، اسمتھ اور ہینڈز کومب نے سنچریاں اسکور کیں۔

وولن گابا، برسبین میں کھیلے جانے والے ڈے نائٹ ٹیسٹ میں میزبان ٹیم نے 288 رنز تین کھلاڑی آؤٹ پر نامکمل اننگز شروع کی، جب مجموعی اسکور 323رنز پر پہنچا تو کپتان اسٹیون اسمتھ 130رنز بناکر وہاب ریاض کی گیند پر وکٹ کیپر سرفراز احمد کو کیچ دے بیٹھے۔

نئے بیٹسمین میڈیسن زیادہ دیر وکٹ پرنہ ٹھہر سکے اور صرف ایک رن بناکر آؤٹ ہوگئے، ان کی وکٹ بھی وہاب ریاض کے حصے میں آئی۔ اگلی وکٹ کیلئے بھی پاکستان کو زیادہ دیر انتظار نہیں کرنا پڑا اور میتھیو ویڈ سات رنز کے اسکور پر محمد عامر کی باہر جاتی ہوئی گیند کو کھیلنے کی کوشش میں سلپ میں اظہر علی کو کیچ دے بیٹھے۔

کینگروز کی وکٹیں گرنے کا سلسلہ یوں ہی جاری رہا اور مچل اسٹارک صرف 10رنز بناکر پویلین لوٹ گئے۔ اس دوران پیٹرہینڈزکومب نے اپنی سنچری مکمل کی، ٹیسٹ کرکٹ میں یہ ان کی پہلی سنچری ہے۔

دوسرے روز پہلا سیشن پاکستانی بولرز کے نام رہا اور 89رنز کے عوض 4آسٹریلوی بیٹسمینوں کو پویلین کی راہ دکھائی ، چائے کے وقفے پر کینگروز نے اپنی پہلی اننگز میں7کٹوں کے نقصان پر377رنز بنالئے تھے۔

چائے کے وقفے کے بعد آسٹریلیانے اپنی اننگز دوبارہ شروع کی، مجموعی اسکورمیں صرف تین رنز کے اضافے کے بعدہیزل ووڈصرف آٹھ رنز بناکرمحمد عامر کا شکار ہوگئے، اسی اسکور پر ہینڈزکومب بھی وکٹ گنوابیٹھے، وہ 105رنز بناکر وہاب ریاض کی گیند پر کلین بولڈ ہوئے۔

دسویں وکٹ کی شراکت میں لایون اور برڈ نے 49رنز بناکر اسکور 429رنز تک پہنچادیا، لایون 29رنز کی اننگز کھیل کر آؤٹ ہوئے۔

پاکستان کی طرف سے محمد عامر اور وہاب ریاض نے 4، 4 جبکہ یاسر شاہ نے2 کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔

چینی شوٹر ژانگ نے پسٹل شوٹنگ میں گولڈ میڈل جیت لیا-

ریو ڈی جنیرو : چین کی شوٹر ژانگ نے 10میٹر پسٹل ایونٹ میں گولڈ میڈل جیت لیا ۔ ٹینس میں عالمی نمبر ون نواک جوکووچ کو شکست ہوگئی ، ریو اولمپک گیمز میں میڈلز ٹیبل پر امریکہ 12 گولڈ میڈلز کیساتھ سرفہرست ہے ۔ 31 ویں اولمپک گیمز برازیل کے شہر ریو ڈی جنیرو میں جاری ہیں ، شوٹنگ کے 10میٹر پسٹل ایونٹ میں سونے کا تمغہ چین کی ژانگ کے نام رہا ۔ 53 کلوگرام ویٹ لفٹنگ کیٹگری میں تائیوان کی ہاسو شاؤ نے طلائی تمغہ جیتا ۔ فلپائن کی ہیڈلین ڈیاز دوسرے اور جنوبی کوریا کی جن ہی تیسرے نمبر پر رہیں ۔ فینسنگ کے مقابلے میں سونے کے تمغے پر اٹلی کے گاروزو نے قبضہ جمایا ۔ فائنل میں امریکی الیگزینڈر کو ناکامی کا سامنا کرنا پڑا ۔ سربیا کے نواک جوکووچ پہلے راؤنڈ میں ناکام ہوگئے ۔ عالمی نمبر ون ٹینس سٹار کو ارجنٹائن کے مارٹن ڈیل پوٹرو نے سٹریٹ سیٹ میں شکست دی ۔ ریو اولمپک میں 12 گولڈ میڈلز کیساتھ امریکہ پہلے ، 8طلائی تمغوں کیساتھ چین دوسرے نمبر ہے ۔

آسٹریلیا کا اگلے سال کے انٹرنیشنل سیزن کا اعلان

کینبرا : کرکٹ آسٹریلیا نے آئندہ سال کے انٹرنیشنل سیزن کا اعلان کر دیا  ہے ، کینگروز ایشیز کے ساتھ ساتھ سہ فریقی ٹی 20 سیریز بھی کھیلیں گے۔ 

زرائع کے مطابق آسٹریلوی بورڈ کی جانب سے 2017-18 انٹرنیشنل شیڈول کا اعلان کیا گیا ہے ، شیڈول کے مطابق انگلینڈ اور آسٹریلیا کے درمیان ایشیز سیریز کا آغاز 23 نومبر 2017 سے ہو گا۔

روائتی حریفوں کے درمیان 5 ایک روزہ میچز بھی کھیلے جائیں گے جبکہ ایشیز میں پہلی مرتبہ ڈے اینڈ نائٹ ٹیسٹ 2دسمبرسےایڈیلیڈ میں کھیلا جائے گا۔

فروری 2018میں سہہ فریقی ٹی 20 سیریزکھیلی جائے گی ، انگلینڈ ،آسٹریلیااور نیوزی لینڈکی ٹیمیں مدمقابل ہوں گی،ٹی20سہ فریقی سیریزکےمیچ آسٹریلیااورنیوزی لینڈ میں کھیلے جائیں گے۔

آسٹریلیا کے خلاف سیریز میں اصل مقابلہ بالرز کے درمیان ہوگا، مصباح الحق

برسبین:  ٹیسٹ کرکٹ ٹیم کے کپتان مصباح الحق کا کہنا ہے کہ دورہ آسٹریلیا مشکل ترین چیلنج ہے اور دونوں ممالک کے بالرز کے درمیان اصل مقابلہ ہوگا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کو انٹرویو دیتے ہوئے قومی ٹیسٹ ٹیم کےکپتان مصباح الحق کا کہنا تھا کہ دورہ آسٹریلیا ایک مشکل چیلنج ہے لیکن ہم نے پوری تیاری کررکھی ہے، نیوزی لینڈ کے ہاتھوں شکست کو بھلا کرمیدان میں اتریں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ آسٹریلوی ٹیم میں کم تجربہ کار کھلاڑی شامل ہیں ہم اس سے بھرپور فائدہ اٹھانے کی کوشش کریں گے، ہم نے آسٹریلوی بیٹنگ لائن کی کمزوریاں جاننے کے لئے کافی محنت کررکھی ہے جب کہ مقابلے کے لئے کنڈیشنز سے بھی ہم آہنگ ہوچکے ہیں، ٹیم کا مڈل آرڈر شدید مشکلات سے دوچار ہے تاہم مجھ سمیت یونس خان، اسد شفیق اور سرفراز کو رنز بنانے ہوں گے بابر اعظم کو ان کی صلاحیتوں کی وجہ سے ڈراپ نہیں کرسکتے۔

مصباح الحق کا کہنا تھا کہ دونوں ممالک کے درمیاں ہونے والی سیریز میں اصل مقابلہ بالرز کے درمیان ہوگا، برسبین میں ہونے والے ڈے اینڈ نائٹ ٹیسٹ میں پاکستانی مایہ ناز اسپنر یاسر شاہ کا کردار اہم ہوگا جب کہ پاکستانی بلے بازوں کو مچل اسٹارک اور ہیزل ووڈ سے خبردار رہنا ہو گا۔

واضح رہے کہ پاکستان اور آسٹریلیا کے درمیان 3 ٹیسٹ میچوں کی سیریز کا پہلا میچ 15 دسمبر سے برسبین مین کھیلا جائے گا تاریخ کا چوتھا ڈے اینڈ نائٹ ٹیسٹ میچ پاکستانی وقت کے مطابق صبح 8 بجے شروع گا۔

دنیا کے بہترین فٹبالر کا ایوارڈ ،چوتھی بار رونالڈو کے نام

ہسپانوی فٹبال کلب ریال میڈرڈ کے31سالہ پرتگالی کھلاڑی کرسٹیانا رونالڈو روایتی حریف میسی اور انیٹائینی گریزمن کو ہرا کر فیفا کا معتبر ایوارڈ’بیلون ڈی اور‘ جیت کر اپنی سبقت ثابت کر دی۔

لیونل میسی سال کے بہترین فٹبالر کو اعزاز پانچ مرتبہ جیت چکے ہیں اور گذشتہ سال بھی یہ اعزاز ان کے نام رہا تھا،ہسپانوی کلب ایٹلیٹیکو میڈرڈ کی نمائندگی کرنے والے فرانسیسی فارورڈ انتوئن گریزمن نے تیسری پوزیشن حاصل کی ہے۔

رونالڈو نے چیمپئن لیگ کے گزشتہ سیزن میں اپنے کلب کو کامیابی دلانے میں اہم کردار ادا کیا تھا جبکہ یورو 2016 ءمیں پرتگال کی فتح حاصل کی تھی جس کی جانب سے 3 گول کیے تھے۔

وہ میسی کے بعد4 مرتبہ یہ ایوارڈ جیتنے والے دوسرے کھلاڑی بن گئے ہیں۔ رونالڈو نے اس سال پرتگال اور رئیل میڈرڈ کیلئے کل 51 گول اسکور کیے۔

کرسچیانو رونالڈو کا کہنا ہے کہ ‘میرے ذہن میں کبھی یہ خیال نہیں آیا کہ میں گولڈن بال 4 بار جیت سکوں گا، خوش ہوں، مجھے فخر اور خوشی محسوس کر رہا ہوں۔

فیفاکے زیراہتمام بیسٹ فیفا فٹبال ایوارڈز کی تقریب زیورخ میں نو جنوری کو منعقد ہوگی۔

وقار یونس پاک،آسٹریلیا سیریز میں کمنٹری کریں گے

 

پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق ہیڈ کوچ وقار یونس پاکستان اور آسٹریلیا کے درمیان سیریز میں کمنٹری کریں گے ۔ وقار یونس کہتے ہیں کہ وہ خود کو کرکٹ سے دور نہیں رکھ سکتے ۔

وقار یونس کا آسٹریلوی اسپورٹس چینل کے ساتھ سیریز کے لیے معاہدہ ہو گیا ہے ۔ ان کا کہنا ہے کہ آسٹریلیا میں کمنٹری کرنے کا تجربہ اچھا رہےگا ، پرانے دوستوں سے بھی ملنے کا موقع ملے گا ۔

وقار یونس نے کہا کہ کوچنگ اور کمنٹری ہی ان کا پروفیشن ہے ، وہ کرکٹ سے دور رہنے کا سوچ بھی نہیں سکتے ۔ انہوں نے کہا کہ برسبین میں آسٹریلیا اور پاکستان کے درمیان سخت مقابلہ ہو گا ۔

Google Analytics Alternative