کھیل

شاہ رخ خان سمیت کولکتہ نائٹ رائیڈرز کے مالکان کو شوکاز نوٹس جاری

نئی دہلی: بالی ووڈ کنگ شاہ رخ خان سمیت کولکتہ نائٹ رائیڈرز کے مالکان کو شوکاز نوٹس جاری کردیے گئے۔

بھارتی انفورسمنٹ ڈپارٹمنٹ نے زرمبادلہ قوانین کی خلاف ورزی پر کولکتہ نائٹ رائیڈرز کے مالکان شاہ رخ خان، ان کی اہلیہ گوری خان اور جوہی چاؤلہ کو شوکاز نوٹس جاری کردیے ہیں۔

آئی پی ایل کی 2 مرتبہ کی چیمپئن سائیڈ کے مالکان پر الزام ہے کہ انہوں نے کے کے آر اسپورٹس کے شیئر ماریشیس کی ایک کمپنی کو اپنی قدر سے کم پر فروخت کیے۔

شاہد آفریدی نے پشاور زلمی چھوڑنے کا اعلان کردیا

شاہد آفریدی کا کہنا ہے کہ ذاتی وجوہات کی بنیاد پر پشاورزلمی سےبطورصدراورکھلاڑی علیحدگی اختیارکررہاہوں۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایک ٹیم سےکپ جیتا،اب دوسری ٹیم کی باری ہے۔

پاکستان کرکٹ ٹیم کی بارباڈوس میں بھرپور پریکٹس

بارباڈوس: پاکستان کرکٹ ٹیم نے ویسٹ انڈیز کے خلاف ٹی ٹوئنٹی سیریز کے لیے بارباڈوس میں بھرپور پریکٹس کی۔

گرین شرٹس منگل کی شب کراچی سے روانہ ہوئیں، دبئی اور لندن میں مختصر قیام کے بعد گزشتہ روز بارباڈوس میں یہ طویل سفر ختم ہوا۔ پاکستان کی ٹیم ویسٹ انڈیز کے خلاف ٹی ٹوئنٹی، ون ڈے اور ٹیسٹ سیریز کھیلے گی۔ ٹی ٹوئنٹی سیریز کا پہلا میچ 26 مارچ کو برج ٹاؤن میں کھیلا جائے گا۔

قومی کرکٹ ٹیم دورہ ویسٹ انڈیز کے دوران 4 ٹی ٹوئنٹی، 3 ون ڈے اور3 ٹیسٹ  میچز کھیلے گی جب کہ ٹی ٹوئنٹی سیریز کا آغاز 26مارچ کو ہوگا دوسرا مقابلہ 30 مارچ، تیسرا یکم اپریل اور چوتھا 2 اپریل کو کھیلا جائے گا۔

پاکستان اور ویسٹ انڈیز کے درمیان ون ڈے سیریز 7 اپریل سے شروع ہوگی، دوسرا ون ڈے 9 اپریل اور تیسرا 11 اپریل کومنعقد ہوگا، تین ٹیسٹ میچزکی سیریزکا پہلا میچ 22 اپریل کوجمیکا، دوسرا 30 اپریل کوبارباڈوس اورتیسرا 10مئی کو ڈومینیکا میں ہوگا۔

آسٹریلوی میڈیا نے کوہلی کو کھیلوں کا ٹرمپ قرار دیدیا

آسٹریلیا اور بھارت کے درمیان چار ٹیسٹ پر مشتمل سریز ایک ایک سے برابر ایک طرف میدان میں دونوں ٹیمیں نبرد آزما ہیں تو دوسری جانب دونوں ممالک کے میڈیا کے درمیان بھی سنسنی خیز سریز چل رہی ہے۔

آسٹریلوی میڈیا نے ویرات کوہلی کو جارح مزاج،کامیاب اور بدتمیز قراردیا اور کہا کہ وہ کھیلوں کی دنیا کے ٹرمپ ہیں۔

سابق بھارتی کرکٹرز نے ویرات کی دھونی کے برعکس جارحانہ کپتانی ،لڑنے جھگڑنے کی حکمت عملی کو آسٹریلوی کپتان رکی پونٹنگ سے ملادیا ۔

لیکن یہ حقیقت ہے کہ کوہلی کپتان بننے کے چکر میں بعض اوقات بدتمیزی پر اتر آتے ہیں،ویرات کوہلی کی ان ہی حرکتوں کی وجہ سے آسٹریلین میڈیا نے انہیں اسپورٹس کی دنیا کا ڈونلڈ ٹرمپ قرار دے دیا۔

آسٹریلوی میڈیا کے مطابق ویرات کوہلی بھی ٹرمپ کی طرح اپنی ناکامیوں کا ذمہ دار میڈیا کو ٹھہراتے ہیں، آسٹریلین میڈیا کے ان ریمارکس پر بھارتی میڈیا بھی تلملا گیا۔

بھارت کے موجودہ اور سابق کرکٹرز ویرات کوہلی کی حمایت میں آگئے،یہاں تک کے بگ بی امیتابھ بچن نے بھی ویرات کوہلی کے حق میں ٹوئٹ کردیا ۔وہ کہتے ہیں آسٹریلین میڈیا نے مان لیا کہ ویرات ونر ہیں اسی لئے انہیں ٹرمپ سے ملایا۔

بات کچھ بھی ہو آسٹریلین میڈیا نے ویرات کوہلی کو پریشر میں لے لیا ہے ،شاید یہی وجہ ہے کہ وہ آسٹریلیا کے خلاف3 ٹیسٹ میں صرف 46 رنز بناسکے ہیں ۔

سیریز تو ایک ایک سے برابر ہے لیکن کل سے شروع ہونے والے آخری ٹیسٹ میں بھارتی ٹیم سخت دباؤ میں آچکی ہے،اگر بھارت سیریز ہارا تو کوہلی کو بھی اپنی کچھ عادات کو بدلنا پڑ سکتا ہے۔

اسپاٹ فکسنگ؛ شرجیل خان ٹربیونل کے سامنے پیش، خالد لطیف غیرحاضر

لاہور: پی ایس ایل اسپاٹ فکسنگ کیس میں شرجیل خان 3 رکنی ٹربیونل کے سامنے پیش ہوگئے جب کہ خالد لطیف علالت کے باعث غیر حاضر رہے۔

نیشنل کرکٹ اکیڈمی لاہور میں معطل کرکٹر شرجیل خان اپنے وکیل کے ہمراہ پیش ہوئے جبکہ پی سی بی شعبہ سکیورٹی اینڈ ویجیلنس کے سربراہ کرنل (ر) محمد اعظم خان اور پی سی بی کے لیگل ایڈوائرز طفیل رضوی و دیگر پیش ہوئے۔

اس موقع پر پی سی بی اینٹی کرپشن یونٹ کی جانب سے عائد کیے گئے الزامات پڑھ کر سنائے گئے، ٹربیونل نے فریقین کے ساتھ اگلی کارروائی کا طریقہ کار طے کیا۔ اینٹی کرپشن یونٹ 14 اپریل کو کرکٹرز پر لگائے گئے الزامات کی تفصیل اور شواہد پیش کرے گا جس پر شرجیل خان 5 مئی کو جواب جمع کروائیں گے اور کرکٹرز کی جانب سے الزامات سے انکار پر پی سی بی اپنے موقف کے حق میں دلائل دے گا۔ حتمی سماعت 15 مئی سے روزانہ کی بنیاد پر کی جائے گی۔

دوسری جانب شرجیل خان کے ساتھ خالد لطیف کو بھی پیش ہونا تھا لیکن انہوں نے طبیعت میں خرابی کے باعث معذرت کر لی جس کے بعد سماعت 31 مارچ تک ملتوی کر دی گئی۔

اسپاٹ فکسنگ کیس ،پی سی بی ٹربیونل کل سے سماعت کریگا

پی سی بی کااینٹی کرپشن ٹربیونل کل سے اسپاٹ فکسنگ کیس کی سماعت کرےگا ،ٹربیونل کی ابتدائی سماعت چیئرمین جسٹس ریٹائرڈ اصغرحیدرکی سربراہی میں ہوگی۔

ٹریبونل کےاراکین میں سابق چیئرمین پی سی بی توقیرضیااورسابق ٹیسٹ کرکٹروسیم باری شامل ہیں،ٹریبونل معطل کرکٹرز شرجیل خان اور خالد لطیف کے کیس کی سماعت کرےگا ۔

شرجیل خان اور خالد لطیف نے پی سی بی کی چارج شیٹ کو چیلنج کیا ہوا ہے،دونوں کرکٹرز پر اسپاٹ فکسنگ میں ملوث ہونے کا الزام ہے ،خالد لطیف پر اینٹی کرپشن کوڈ کی 6اور شرجیل خان پر 5شقوں کی خلاف ورزی کاالزام ہے ۔

باکسرعامر خان نے اہل خانہ سے جھگڑے کی وجہ بتا دی

لندن: پاکستانی نژاد برطانوی باکسر عامر خان نے اہل خانہ سے دوری کی وجہ بتا دی۔

باکسر عامر خان اور ان کے اہل خانہ کے درمیان گزشتہ چند ماہ سے چپقلش چلی آرہی ہے اور یہی افواہیں گردش کررہی تھیں کہ شاید اس کی وجہ ان کی اہلیہ فریال مخدوم ہیں تاہم باکسر نے خود انکشاف کیا ہے کہ ان کے اور والدین کی درمیان تعلقات کی خرابی اور دوری کی وجہ مالی معاملات میں بے ضابطگی ہے۔ عامر خان کا کہنا تھا کہ میرے پراپرٹی  مشیر کے علاوہ اکاؤنٹیٹ بھی تھے لیکن میں نے اپنے والد اورچچا  پر بھروسہ کرتے ہوئے انہیں فارغ کردیا جس کے بعد ایک فائٹ میں شکست کے بعد ہی مالی مسائل کا سامنا کرنا پڑا اور یہ سب کچھ قریبی لوگوں کی بدعنوانی کی وجہ سے ہوا۔

باکسر عامر خان کی کوچنگ ٹیم میں ان کے والد شاہ خان، چچا تاز خان اور سب سے قریبی دوست ساج محمد شامل تھے جو انہیں رنگ میں رہنمائی کے ساتھ ساتھ آئندہ کی حکمت عملی کے حوالے سے مشورے بھی دیا کرتے تھے تاہم باکسر کا کہنا ہے کہ ان کی تمام تر توجہ باکسنگ پر تھی اور انہوں نے آنکھیں بند کر کے اپنی ٹیم پر بھروسہ کیا لیکن افسوس سے کہنا پڑ رہا ہے کہ ان کے اعتماد کو ٹھیس پہنچائی گئی۔

عامر خان نے کہا کہ جب آپ کے پاس بے حساب رقم آرہی ہو تو سب کچھ ٹھیک چل رہا ہوتا ہے اور جب آمدنی میں کمی آئے یا رک جائے تو آپ کو لوگوں کے مختلف رنگ دکھائی دیتے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ میں نے اس وقت لوگوں کو تبدیل ہوتے دیکھا جب میں نے رنگ میں شکست کھائی جب کہ اس سے قبل جب میں 21 یا 22 سال کا تھا اور ایک کے بعد ایک فائٹ جیت رہا تھا تو اس وقت سب کچھ ٹھیک تھا اور میں نے کبھی نہیں سوچا تھا کہ ایسا بھی وقت کبھی آئے گا۔

باکسر عامر خان نے کہا کہ انہیں یقین ہے کہ وہ بہت فرمانبردار بیٹے اور بھائی ہیں جنہوں نے زندگی بھر اپنے خاندان کی بھلائی کی خاطر کام کئے اور جو کچھ بھی میں نے کیا اس میں صرف اہل خانہ کی بہتری ہی بنیادی مقصد تھا تاہم اگر میں ایک اور فائٹ جیت گیا تو تمام چیزیں درست ہوجائیں گی جس کے لئے میرے پاس 2 سال ہیں۔

انضمام الحق نے سلمان بٹ کی ٹیم میں واپسی کا اشارہ دیدیا

انہوں نے کہا کہ 2010ءکی اسپاٹ فکسنگ میں ملوث کھلاڑیوں سے غلطی ہوئی، صرف عامر کو دوبارہ کھیلنے کا موقع ملا، آئی سی سی نے انہیں جو سزا دے دی وہ کافی ہے، بات اس سے آگے نہیں جانی چاہیے ۔

انضمام الحق کا کہنا ہے کہ فکسنگ میں ملوث کھلاڑیوں کو سزائیں آئی سی سی اور پی سی بی کے مروجہ قوانین کے مطابق ملنی چاہئیں،وہ خود سے سزائیں تجویز نہیں کر سکتے ۔

بانوے کے ورلڈکپ کی یادوں کو تازہ کرتے ہو ئے انضمام الحق نے کہا کہ یہ پاکستان کرکٹ کی تاریخ کی سب سے بڑی کامیابی تھی۔

Google Analytics Alternative