کھیل

دفاعی چیمپئین سرینا ولیمز ریو اولمپکس سے باہر

ریو ڈی جنیرو: ریو اولمپکس میں عالمی نمبر ایک اور دفاعی چیمپئین امریکہ کی سرینا ولیمز ویمنز سنگلز ٹینس ایونٹ کے تھرڈ راؤنڈ میں شکست کے بعد ایونٹ سے باہر ہوگئیں۔

یوکرین کی ایلینا سیویٹولینا نے امریکی ٹینس اسٹار سرینا ولیمز کو چھ، چار اور چھ، تین سے شکست دی، سرینا میچ میں مکمل آف کلر دکھائی دیں، الینا نے پہلا سیٹ چھ چار سے جیتا، دوسرے سیٹ میں بھی امریکہ ٹینس اسٹار مزاحمت نہ کرسکیں، دفاعی چیمپئین سرینا ولیمز کو تھرڈ راؤنڈ میں یوکرین کے الینا سویٹولینا کے ہاتھوں ناکامی کا سامنا کرنا پڑا اور چھ تین سے ناکامی کے بعد ریو اولمپکس سے باہر ہوگئیں۔

سرینا کی شکست کو ریو اولمپکس کا سب سے بڑا اپ سیٹ قرار دیا جارہا ہے۔

کپتان مصباح الحق اور لیگ اسپنر یاسر شاہ کا نام لارڈز کے آنر بورڈ پر درج کردیا گیا

لندن : پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان مصباح الحق اور لیگ اسپنر یاسر شاہ کا نام لارڈز کے آنر بورڈ پر درج کردیا گیا, یہ کرکٹ کی تاریخ میں پہلا موقع ہے کہ کھلاڑیوں کی موجودگی میں ان کے نام بورڈ پردرج کیے گئے۔

قومی ٹیسٹ ٹیم کے کپتان مصباح الحق اور یاسر شاہ نے لارڈز میں خوشگوار یادوں کو تازہ کیا، لارڈز ٹیسٹ کی پہلی اننگز میں کپتان مصباح الحق نے شاندار سینچری بناکر آنر بورڈ پر اپنا نام درج کرایا، لارڈز انتظامیہ نے مصباح کے سامنے ان کا نام آنر بورڈ پر درج کیا۔

مصباح الحق 42 سال 47 دن کی عمر میں بطور سینچری مکمل کرنے والے دنیا کے 9ویں کپتان بھی بن چکے ہیں، اس کے ساتھ مصباح الحق پاکستانی تاریخ کے سب سے عمر رسیدہ کپتان بھی بن گئے ہیں۔

سینچری  مکمل کرنے پر کپتان بہت خوش نظر آئے اور انہوں نے گراؤنڈ میں 10 پُش اپس لگا کر اس لمحے کو دنیائے تاریخ کے لیے یادگار بنا دیا۔

یاسر شاہ  لارڈز ٹیسٹ میں دس وکٹیں حاصل کرکے آنر بورڈ پر نام درج کرانے والے پہلے ایشیائی اسپنر بنے، انتظامیہ نے یاسر کی موجودگی میں آنر بورڈ پر ان کا نام درج کیا۔

یاسر  شاہ نے لارڈز ٹیسٹ میں عمدہ بولننگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے 10 وکٹیں حاصل کرتے ہوئے پاکستان کو فتح دلوائی تھی۔ انگلینڈ کے خلاف ٹیسٹ سریز میں یاسر شاہ نے 15 ٹیسٹ میچز میں سب سے زیادہ وکٹیں لے کر 120 سالہ ریکارڈ توڑ کر اعزاز اپنے نام کرلیا تھا۔

یہ کرکٹ کی تاریخ میں پہلی بار ہوا ہے کہ آنر بورڈ پرکھلاڑیوں کا نام انکی موجودگی میں درج کیا گیا ہو۔

 

انگلینڈ اور آئر لینڈ کیخلاف پاکستانی ون ڈے اسکواڈ کا اعلان

کراچی: پاکستان نے رواں ماہ آئرلینڈ اور انگلینڈ کے خلاف ہونے والی ون ڈے سیریز کے لیے قومی ٹیم کا اعلان کردیا جس میں عمرگل کی طویل عرصے بعد واپسی ہوئی ہے۔

32 سالہ فاسٹ باؤلر عمرگل طویل عرصے بعد ٹیم میں جگہ بنانے میں کامیاب ہوئے ہیں اور سلیکٹرز نے انھیں بہترفیلڈنگ کی صلاحیت اور بہتر فٹنس کی وجہ سے محمدعرفان پر ترجیح دی ہے۔

عمرگل نے 22 اپریل 2015 کو بنگلہ دیش کے خلاف ڈھاکا میں آخری دفعہ ون ڈے میچ کھیلا تھا جس میں قومی ٹیم کو8 وکٹوں سے شکست ہوئی تھی اور عمر گل کوئی وکٹ حاصل کرنے میں ناکام رہے تھے جبکہ 7 اوورز کے کوٹے میں 53 رنز بھی دیے تھے۔

انگلینڈ کے خلاف جاری ٹیسٹ سیریز کے تیسرے میچ میں اپنی بہترین صلاحیتوں سے کرکٹ کے ماہرین کو متاثرکرنے والے نوجوان بلے باز سمیع اسلم کو بھی ون ڈے ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔

ون ڈے ٹیم میں شرجیل خان کی دوسال بعد واپسی ہوئی ہے، ان کو پاکستان اے ٹیم کے دورہ انگلینڈ میں 63 کی اوسط سے رنز بنانے پر ٹیم کا حصہ بنایا گیا ہے۔

شرجیل خان نے اے ٹیم کی نمائندگی کرتے ہوئے سری لنکا اے اور انگلینڈ لائنز کے خلاف بالترتیب 90 اور 125 رنز کی اننگز کھیلی تھی۔

چف سلیکٹر انضمام الحق نے ٹیم کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ‘ٹیم کے انتخاب کے لیے ٹیم انتظامیہ اور کپتان سے مشورہ کیا گیا اور اس معاملے میں ان سب کی رضامندی شامل ہے’۔

انضمام الحق کا کہنا تھا کہ ‘ٹیم کو انگلینڈ کی کنڈیشنز اور کچھ کھلاڑیوں کی ڈومیسٹک اور اے ٹیم کے دورے میں حالیہ کارکردگی کو مدنظر رکھتے ہوئے منتخب کیا گیا ہے’۔

چیف سلیکٹر نے کہا کہ ‘ٹیم تجربہ کار اور نوجوان کھلاڑیوں پر مشتمل بہترین دستہ ہے اور سلیکٹرز کو یقین ہے کہ ٹیم اچھا کرے گی’۔

پاکستان ٹیم آئرلینڈ کے خلاف دو ون ڈے میچز 18 اگست اور 20 اگست کو کھیلے گی جس کے بعد انگلینڈ کے خلاف 5 میچوں کی سیریز ہوگی۔

آئرلینڈ اور انگلینڈ کے خلاف ون ڈے سیریز کے لیے پاکستان ٹیم میں شامل کھلاڑی درج ذیل ہیں۔

اوپنرز: اظہرعلی (کپتان)، شرجیل خان، سمیع اسلم

مڈل آرڈر: محمد حفیظ، بابراعظم، شعیب ملک

وکٹ کیپر: سرفرازاحمد، محمد رضوان

فاسٹ باؤلرز: محمد عامر، وہاب ریاض، حسن علی، عمرگل

اسپنرز: یاسرشاہ، عماد وسیم، محمد نواز

چین کی شوٹر ژانگ نے 10میٹر پسٹل ایونٹ میں گولڈ میڈل جیت لیا –

ریو ڈی جنیرو چین کی شوٹر ژانگ نے 10میٹر پسٹل ایونٹ میں گولڈ میڈل جیت لیا ۔ ٹینس میں عالمی نمبر ون نواک جوکووچ کو شکست ہوگئی ، ریو اولمپک گیمز میں میڈلز ٹیبل پر امریکہ 12 گولڈ میڈلز کیساتھ سرفہرست ہے ۔ 31 ویں اولمپک گیمز برازیل کے شہر ریو ڈی جنیرو میں جاری ہیں ، شوٹنگ کے 10میٹر پسٹل ایونٹ میں سونے کا تمغہ چین کی ژانگ کے نام رہا ۔ 53 کلوگرام ویٹ لفٹنگ کیٹگری میں تائیوان کی ہاسو شاؤ نے طلائی تمغہ جیتا ۔ فلپائن کی ہیڈلین ڈیاز دوسرے اور جنوبی کوریا کی جن ہی تیسرے نمبر پر رہیں ۔ فینسنگ کے مقابلے میں سونے کے تمغے پر اٹلی کے گاروزو نے قبضہ جمایا ۔ فائنل میں امریکی الیگزینڈر کو ناکامی کا سامنا کرنا پڑا ۔ سربیا کے نواک جوکووچ پہلے راؤنڈ میں ناکام ہوگئے ۔ عالمی نمبر ون ٹینس سٹار کو ارجنٹائن کے مارٹن ڈیل پوٹرو نے سٹریٹ سیٹ میں شکست دی ۔ ریو اولمپک میں 12 گولڈ میڈلز کیساتھ امریکہ پہلے ، 8طلائی تمغوں کیساتھ چین دوسرے نمبر ہے ۔

 

برازیل، جرمنی ریواولمپکس میں مشکلات کا شکار

ریو ڈی جنیرو: اولمپک میزبان برازیل کی فٹ بال ٹیم گروپ اے میں عراق کے خلاف میچ میں برابری کے بعد ایک دفعہ پھر کسی بڑے ایونٹ سے باہر ہونے کے قریب پہنچ گئی۔

برازیل کو ریواولمپکس 2016 سے باہر ہونے سے بچنے کے لیے بدھ کو ڈنمارک کے خلاف ہونے والے میچ میں کامیابی حاصل کرنا ضروری ہے۔

نیمار کی قیادت میں برازیلی ٹیم گروپ اے میں اپنے پہلے میچ میں جنوبی افریقہ سے جیتنے میں ناکام ہوئی تھی اور میچ برابری پر ختم ہوگیا تھا جبکہ عراق کے خلاف دوسرے میچ میں سابق عالمی چمپیئن فیورٹ تھی تاہم کامیاب نہ ہوسکی۔

فٹ بال ورلڈ کپ 2014 میں بھی میزبان برازیل کو جرمنی کے ہاتھوں 1-7 کی عبرت ناک شکست کے ساتھ ٹورنامنٹ سے باہر ہونا پڑا تھا۔

خیال ظاہر کیا جارہا تھا کہ نیمار کی موجودگی میں 5 مرتبہ کی عالمی چمپیئن ٹیم ایک دفعہ پھر اولمپکس میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرے گی لیکن وہ ان امیدوں پر پورے نہیں اترسکے۔

پرتگال اور نائجیریا دو ٹیمیں ہیں جنھوں نے کوارٹرفائنل میں اپنی جگہ بنالی۔ پرتگال نے ہنڈوراس کو 1-2 اور نائجیریا نے سویڈن کو 0-1 سے شکست دی تھی۔

فٹ بال کے دیگر مقابلوں میں ارجنٹینا، ڈنمارک اور میکسیکو کی ٹیموں نے بھی اپنے اپنے میچوں میں کامیابی حاصل کی۔

عالمی چمپیئن جرمنی کو جنوبی کوریا سے جیت حاصل کرنے میں ناکامی کا منہ دیکھنا پڑا، سلواڈور میں کھیلے گئے میچ میں جرمنی نے 3 گول کئے اور جواب میں جنوبی کوریا نے بھی تین گول کئے یوں 3-3 سے یہ میچ برابر رہا۔

جرمنی اپنے گروپ میں میکسیکو اور جنوبی کوریا سے پوائنٹس کی بنیاد پر پیچھے ہے اور گروپ میں تیسرے نمبر پر موجود ہیں۔

سری لنکا کی آسٹریلیا کو ٹیسٹ سیریز میں شکست

گال: سری لنکا نے آسٹریلیا کو سیریز کے دوسرے ٹیسٹ میچ کے تیسرے روز 229 رنز سے شکست دے کر 3 میچوں کی سیریز وارن-مرلی دھرن ٹرافی میں 2-0 کی فیصلہ کن برتری حاصل کر لی۔

گال میں کھیلے گئے میچ کے تیسرے روز جب کھیل کا آغاز ہوا تو آسٹریلیا کا اسکور 3 وکٹوں کے نقصان پر 25 رنز تھا جبکہ انھیں جیت کے لیے 388 رنز درکار تھے۔

سری لنکا کے دلروان پریرانے شاندار باؤلنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے میزبان ٹیم کو مختصر مجموعے میں سمیٹ دیا۔

ڈیوڈ وارنر واحد بلے باز تھے جنھوں نے سب سے زیادہ 41 رنز بنائے ان کے علاوہ دیگر بلے باز مکمل طور پر ناکام رہے۔

کپتان اسٹیون اسمتھ اور ڈیوڈ وارنر کی شراکت میں 51 رنز کا اضافہ ہوا، وارنر کے آؤٹ ہونے کے بعد اسمتھ نے کرس ووگس کے ساتھ 19 بنائے تھے لیکن پریرا نے انھیں 30 کے انفرادی اسکور پر پویلین بھیج دیا۔

ووگس 28، مچل اسٹارک 24 اور پیٹرنیول 24 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

آسٹریلیا کی پوری ٹیم 183 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئی اور میچ 229 رنز سے ہار گئی یوں سری لنکا نے سیریز میں فیصلہ کن برتری حاصل کرلی۔

قبل ازیں سری لنکا نے پہلی اننگز میں 281 رنز بنائے تھے جس کے بعد آسٹریلیا کی ٹیم 106 رنز بنا سکی جبکہ دوسری اننگز میں سری لنکا نے 413 رنز کی برتری حاصل کی۔

گال ٹیسٹ کے دوسرے روز 21 وکٹیں گری تھیں اور تیسرے روز سری لنکا نے بقیہ 7 وکٹیں بھی حاصل کر کے میچ کا نتیجہ اپنے حق میں کر دیا۔

سری لنکا کی جانب سے دوسری اننگز میں پریرا نے 6 اور ہیراتھ نے 2 وکٹیں حاصل کیں۔

پریرا میچ 10 وکٹیں اور نصف سنچری بنانے والے پہلے سری لنکن کھلاڑی ہیں اسی شاندار آل راؤنڈ کارکردگی پر انھیں میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔

سری لنکا نے پالی کیلے میں کھیلے گئے پہلے میچ میں آسٹریلیا کو 106 رنز سے شکست دے کر سیریز میں 0-1 برتری حاصل کی تھی۔

سیریز کا تیسرا اور آخری ٹیسٹ میچ 13 اگست کو کولمبو میں شروع ہوگا۔

مجموعی طور پر ٹیم کی کارکردگی اچھی رہی، مصباح الحق

برمنگھم: پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان مصباح الحق کا کہنا ہے کہ انگلینڈ کے خلاف تیسرے ٹیسٹ میں مجموعی طور پر ٹیم کی کارکردگی اچھی رہی، ایک دو سیشنز کی وجہ سے انگلینڈ جیت گیا، مایوسی کی کوئی بات نہیں ہے۔

پاکستان ٹیم کے کپتان مصباح الحق نےایجبیسٹن ٹیسٹ کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاکہ مایوسی کی بات نہیںکھیل میں ایساہوتاہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ٹیم کی کار کردگی سےمطمئن ہوں ۔

مصباح نے مزید کہا کہ ایک دو سیشنز کی وجہ سے انگلینڈیہ ٹیسٹ جیت گیا ۔

برمنگھم ٹیسٹ میں انگلینڈ نے پاکستان کو 141 رنز سے شکست دے دی

برمنگھم: برمنگھم ٹیسٹ میں انگلینڈ نے پاکستان کو 141 رنز سے شکست دے کر 4 میچز پر مشتمل سیریز میں 1-2 کی برتری حاصل کرلی۔

برمنگھم کے ایجبسٹن گراؤنڈ میں کھیلے گئے میچ کے آخری روز انگلینڈ کی جانب سے دیئے گئے 343 رنز کے ہدف کے تعاقب میں پاکستان کی پوری ٹیم 201 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئی۔ ہدف کے تعاقب میں ایک مرتبہ پھر قومی ٹیم کی بیٹنگ لائن ریت کی دیوار ثابت ہوئی اور وقفے وقفے سے وکٹیں گرتی چلی گئیں۔ اوپننگ بلے باز محمد حفیظ ایک مرتبہ پھر ناکام رہے اور صرف 2 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے جب کہ پہلی اننگز میں سنچری بنانے والے اظہرعلی 38 رنز ہی بنا سکے۔ ٹیم کا مجموعی اسکور 92 تک پہنچا تو یونس خان بھی 4 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے۔

چوتھی وکٹ پر سمیع اسلم اور کپتان مصباح الحق نے 32 رنز کی شراکت قائم کی تو کپتان بھی 10 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئے۔ اسد شیق اور وکٹ کیپر بلے باز سرفراز احمد بغیر کوئی رنز بنائے آؤٹ ہوئے جب کہ سمیع اسلم سب سے زیادہ 70 رنز بنا کر پویلین لوٹے تو میچ بچانا بھی مشکل دکھائی دیا جس کے بعد یاسر شاہ 7 اور محمد عامر 16 رنز بنا کر پویلین لوٹے۔

Google Analytics Alternative