کھیل

افغانستان پریمیئر لیگ کل شروع ہو گی

شارجہ : افغانستان پریمیئر لیگ کا پہلا ایڈیشن کل سے شارجہ میں شروع ہو رہا ہے۔

ایونٹ میں پانچ ٹیمیں حصہ لے رہی ہیں جن میں کئی انٹرنیشنل کرکٹرز ایکشن میں نظر آئیں گے۔

بلند و بالا چھکے لگانے والے پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شاہد آفریدی، چھکوں کے بادشاہ کرس گیل، اسپن کے جادوگر راشد خان، نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان برینڈن میکولم، ویسٹ انڈیز کرکٹ ٹیم کے آل راؤنڈر آندرے رسل، بنگلادیش کرکٹ ٹیم کے جارح مزاج اوپنر تمیم اقبال اور سابق کیوی بیٹسمین لیوک رونکی سمیت کئی کھلاڑی شائقین کو اپنے کھیل سے محضوظ کریں گے۔

ایونٹ میں پانچ ٹیمیں شریک ہیں جن میں کابل، پکتیا رائلز، قندھار کنگز، بلخ لیجنڈز اور ننگرہار لیوپرڈز شامل ہیں۔

ایونٹ میں 26 میچز کھیلے جائیں گے جنہیں پاکستان کا پہلا اسپورٹس چینل جیو سوپر براہ راست نشر کرے گا۔

ورلڈ اسکواش فیڈریشن نے کراچی میں انٹرنیشنل ایونٹ کی منظوری دے دی

کراچی: ورلڈ اسکواش فیڈریشن نے پاکستان کو ڈی اے کپ اسکواش ٹورنامنٹ کراچی میں کرانے کی منظوری  دے دی ہے۔

ورلڈ اسکواش فیڈریشن نے کراچی میں انٹرنیشنل ایونٹ کی منظوری دے دی ہے۔  ڈی اے کپ اسکواش ٹورنامنٹ 22 سے 24 نومبر کھیلا جائے گا اور اس ٹورنامنٹ کے ڈائریکٹر راشد احمد ہوں گے۔

ٹورنامنٹ میں مینز اور ویمنز ایونٹس کے مقابلے ہوں گے، مینز ایونٹ کی انعامی رقم 20 ہزار ڈالرز ہوگی، ویمن ایونٹ کے لیے انعامی رقم 5 ہزار ڈالرز رکھی گئی ہے۔

پی ایس ایل کے چوتھے ایڈیشن کیلئے اسٹیو اسمتھ نے بھی معاہدہ کرلیا

دبئی: پاکستان سپر لیگ کے چوتھے ایڈیشن کو چار چاند لگانے کے لیے بڑے بڑے نام شامل ہورہے ہیں، جنوبی افریقہ کے اے بی ڈویلیئرز کے بعد آسٹریلین اسٹار اسٹیو اسمتھ نے بھی لیگ سے معاہدہ کرلیا۔

پاکستان سپر لیگ کے سیکریٹریٹ کی جانب سے جاری بیان کے مطابق ٹی ٹوئنٹی کرکٹ کے چمکتے ستارے ایک مرتبہ پھر پی ایس ایل کا حصہ بننے جارہے ہیں۔

جنوبی افریقا کے مایہ ناز بلے باز اے بی ڈویلیئر کے بعد سابق آسٹریلوی کپتان اسٹیو اسمتھ نے بھی پی ایس ایل 4 کے لیے معاہدہ کرلیا، انہیں پلاٹینم کیٹیگری میں شامل کیا گیا ہے۔

پلاٹینئم کیٹیگری میں شامل دیگر کھلاڑیوں میں برینڈن میکولم، اے بی ڈویلیئرز، کرس لین، کولن منرو، لیوک رونچی، ڈیوائن براو، سنیل نارائن، کیرون پولارڈ، عمران طاہر، کولن انگرام، مچل میکلنگن، تھسارا پریرا اور راشد خان شامل ہیں۔

فوٹو: بشکریہ پی ایس ایل

نیوزی لینڈ کے وکٹ کیپر لیوک رونکی کو ڈائمنڈ سے پلاٹینم کیٹگری میں ترقی دے دی گئی ہے اور وہ پی ایس ایل 4 کا بے تابی سے انتظار کر رہے ہیں۔

حال ہی میں آئی سی سی رینکنگ میں نمبر ون آل راؤنڈر کا درجہ پانے والے افغانستان کے راشد خان بھی پی ایس ایل کا حصہ ہوں گے جو کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی نمائندگی کر سکتے ہیں۔

لیگ کے تیسرے ایڈیشن میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی نمائندگی کرنے والے سری لنکن آل راؤنڈر تھسارا پریرا بھی پی ایس ایل 4 کا حصہ ہوں گے۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین احسان مانی کا کہنا ہے کہ آئندہ چند روز میں پی ایس ایل میں شامل ہونے والے مزید کھلاڑیوں کے ناموں کا اعلان کیا جائے گا۔

یاد رہے کہ پاکستان سپر لیگ کے چوتھے ایڈیشن کا باقاعدہ آغاز 14 فروری 2019 سے ہوگا۔

ریپ کے الزامات: رونالڈو پرتگال کے فٹبال اسکواڈ سے باہر

ریپ کے الزامات کا سامنا کرنے والے عالمی شہرت یافتہ فٹبالر کرسٹیانو رونالڈو کو پرتگال کے آئندہ میچوں کے لیے ٹیم اسکواڈ کا حصہ نہیں بنایا گیا۔

واضح رہے کہ 2 روز قبل 34 سالہ سابق امریکی ماڈل کیتھرین مایورگا نے کرسٹیانو رونالڈو پر ریپ کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا تھا کہ 2009 میں لاس ویگاس میں عالمی شہرت یافتہ فٹبالر نے ان کا ریپ کیا تھا۔

تاہم کرسٹیانو رونالڈو نے سابق ماڈل اور امریکی شہری کی جانب سے لگائے گئے ریپ کے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے انہیں جھوٹا قرار دیا تھا۔

رونالڈو کو آرام دینے کی غرض سے 11 اکتوبر کو پولینڈ میں ہونے والی یوئیفا نیشنز لیگ کے دوسرے میچ کے لیے اسکواڈ کا حصہ نہیں بنایا گیا۔

اس کے علاوہ انہیں 15 اکتوبر کو گلاسگو میں اسکاٹ لینڈ کے خلاف ہونے والے میچ کے لیے بھی منتخب نہیں کیا گیا۔

امریکی خبر رساں ادارے اے پی کی رپورٹ کے مطابق پرتگال کے کوچ فرنینڈو سانتوز کا کہنا تھا کہ رونالڈو کو اگلے ماہ بین الاقوامی کھیلوں کے لیے بھی نہیں بلایا جائے گا۔

انہوں نے بتایا کہ یہ فیصلہ، رونالڈو، پرتگال کی سوکر فیڈریشن کے صدر اور ان کے درمیان ہونے والی ملاقات کے بعد لیا گیا۔

ان کا کہنا تھا کہ ’ہم نے فیصلہ کیا ہے اگلے 2 اسکواڈ سلیکشن تک رونالڈو ہمارے لیے آپشن نہیں ہوں گے۔

سانتوز نے اس ملاقات کے حوالے سے مزید تفصیلات بتانے سے گریز کیا اور اس حوالے سے رونالڈو کے خیالات کے حوالے سے سوال پر بھی رائے دینے سے انکار کردیا اور کہا کہ ‘یہ معلومات نجی اور ذاتی ہیں‘۔

ان کا کہنا تھا کہ ’ہمیں امید ہے کہ رونالڈو دوبارہ پرتگال کے لیے کھیلیں گے‘۔

واضح رہے کہ رونالڈو نے اس سے قبل ورلڈ کپ کے بعد ہونے والے پرتگال کے میچز میں بھی شرکت نہیں کی تھی۔

سانتوز نے اس کی وجہ رونالڈو کے اطالوی کلب یوونٹس میں منتقلی بتائی تھی۔

کرسٹیانو رونالڈو جو اپنے کیریئر کے اختتام کے قریب ہیں، پرتگال کے قومی ہیرو اور سب سے زیادہ مقبول شخصیت تصور کیے جاتے ہیں۔

وہ پرتگال کے سب سے زیادہ تجربہ رکھنے والے کھلاڑی ہیں جنہوں نے 154 انٹرنیشنل میچز میں اپنے ملک کی نمائندگی کی جن میں 85 گولز کیے جس کے ساتھ وہ ملک کے لیے سب سے زیادہ گول کرنے والے کھلاڑی بھی ہیں۔

پرتھوی شا ڈیبیو پر سنچری بنانے والے سب سے کم عمر بھارتی بلے باز

نوجوان بھارتی بلے باز پرتھوی شا نے ویسٹ انڈیز کے خلاف پہلے ٹیسٹ میچ میں سنچری اسکور کر کے ڈیبیو پر سنچری اسکور کرنے والے سب سے کم عمر بھارتی بلے باز بن گئے۔

ویسٹ انڈیز کے خلاف راجکوٹ میں کھیلے جا رہے ٹیسٹ میچ میں لوکیش راہل کے جلد آؤٹ ہونے کے بعد پرتھوی شا نے چتیشور پجارا کے ہمراہ دوسری وکٹ کے لیے 206 رنز کی شراکت قائم کرتے ہوئے سنچری اسکور کر کے یہ کارنامہ انجام دیا۔

نوجوان بلے باز نے اپنے کیریئر کی پہلی ٹیسٹ اننگز کے دوران صرف 99 گیندوں پر سنچری مکمل کی اور بھارت کی جانب سے ڈیبیو پر سنچری اسکور کرنے والے سب سے نوجوان کرکٹر بن گئے۔

شا پہلے دن چائے کے وقفے سے چند گیندوں قبل دویندرا بشو کی گیند پر وکٹیں گنوا بیٹھے لیکن آؤٹ ہونے سے قبل انہوں نے 154 گیندوں پر 134رنز بنائے۔

آئندہ ماہ 9نومبر کو 19 سال کے ہونے والے پرتھوی شا بھارت کی جانب سے سنچری بنانے والے دوسرے کم عرم ترین بلے باز بھی بن گئے، ان سے قبل یہ اعزاز سابق عظیم بلے باز سچن ٹنڈولکر کے پاس تھا جنہوں نے 1990 میں 17سال 112دن کی عمر میں انگلینڈ کے خلاف مانچسٹر کے مقام پر سنچری اسکور کر کے یہ ریکارڈ قائم کیا تھا جو اب تک انہی کے نام ہے۔

ٹنڈولکر نے شاندار اننگز کھیلنے پر نوجوان کھلاڑی کو خصوصی طور پر مبارکباد دی جبکہ ان کے ساتھ ساتھ وی وی ایس لکشمن اور وریندر سہواگ نے بھی ڈیبیو پر کارنامہ انجام دینے والے کھلاڑی کو روشن مستقبل کی نوید سنائی۔

اس اننگز کے دوران ہی پرتھوی شا ڈیبیو پر 100 سے کم گیندوں میں سنچری اسکور کرنے والے دنیا کے تیسرے کھلاڑی بن گئے۔

ڈیبیو پر تیز ترین سنچری کا اعزاز شیکھر دھاون کے پاس ہے جنہوں نے 85گیندوں پر یہ کارنامہ انجام دیا تھا جبکہ ویسٹ انڈیز کے ڈیوین اسمتھ نے 93 اور شا نے 99 گیندوں پر اپنے پہلے ٹیسٹ میچ میں سنچری بنائی۔

میچ کا احوال

راجکوٹ میں کھیلے جا رہے سیریز کے پہلے ٹیسٹ میچ میں بھارت کے کپتان ویرات کوہلی نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا تو لوکیش راہل بغیر کوئی رن بنائے پویلین لوٹ گئے۔

اس موقع پر پہلا میچ کھیلنے والے پرتھوی شا کا ساتھ دینے تجربہ کار چتیشور پجارا آئے اور دونوں کھلاڑیوں نے عمدہ بیٹنگ کرتے ہوئے کھانے کے وقفے تک مزید کوئی وکٹ نہ گرنے دی۔

کھانے کے وقفے کے بعد شا نے تاریخ رقم کرتے ہوئے ڈیبیو پر سنچری اسکور کرنے والے سب سے کم عمر بھارتی بلے باز بن گئے۔

انہوں نے دوسری وکٹ کے لیے پجارا کے ہمراہ 206 رنز جوڑے اور اس شراکت کا خاتمہ اس وقت ہوا جب پجارا 86رنز بنانے کے بعد پویلین لوٹے۔

مزید پڑھیں: رونالڈو پرتگال کے فٹبال اسکواڈ سے باہر

اسکور 232 تک پہنچا تو شا کی ہمت بھی جواب دے گئی لیکن آؤٹ ہونے سے قبل 154 گیندوں پر 19 چوکوں کی مدد سے 134 رنز کی شاندار اننگز کھیلی۔

کوہلی نے ہمیشہ کی طرح ایک مرتبہ پھر عمدہ اننگز کھیلی اور اجنکیا راہانے کے ہمراہ چوتھی وکٹ کے لیے 105رنز کی شراکت قائم کر کے اپنی ٹیم کی پوزیشن کو مزید مستحکم کردیا، راہانے 41رنز بنانے کے آؤٹ ہوئے۔

جب میچ کے پہلے دن کا کھیل ختم ہوا تو بھارت نے 4وکٹوں کے نقصان پر 364رنز بنائے تھے، کوہلی 72 اور ریشابھ پانٹ 17رنز بنا کر وکٹ پر موجود ہیں۔

ورلڈ کپ 2019 کی ٹرافی نے لاہور میں جلوہ دکھا دیا

لاہور: آئی سی سی ورلڈکپ ٹرافی پاکستان پہنچ گئی ہے۔

آئی سی سی ورلڈ کپ ٹرافی دو دن کے دورے پر لاہور پہنچ گئی۔ کرکٹرمحمد عرفان نے ٹرافی کے ساتھ ٹورازم بس پرشہرکا چکر لگایا۔ سونے اور چاندی سے بنی گیارہ کلووزنی ٹرافی آج صبح لاہور پہنچی ، آئی سی سی مارکیٹنگ شعبے کے شمریز شیٹھی اس ٹرافی کے ساتھ آئے ہیں۔ دوپہر ایک بج کر تیس منٹ پر قذافی اسٹیڈیم کے مین داخلی دروازے پر میڈیا کے سامنے کرکٹر محمد عرفان لے کر آئے۔

فوٹو سیشن کے بعد ڈھول کی تھاپ پر عرفان ٹرافی لے لاہور شہر کی سیر کے لئے مختص بس پر سوار ہوۓ اور گلبرگ، جیل روڈ، کینال روڈ، مال روڈ، بادشاہی مسجد، شاہی قلعہ سے ہوتی ہوئی واپس اسٹیڈیم پہنچی۔

پروگرام کے مطابق جمعرات کو اس ٹرافی کو گورنمنٹ کالج، شوکت خانم اور پھر واہگہ بارڈر لے جایا جائے گا۔ دوسرے مرحلے میں ٹرافی 5 اور6 اکتوبرکوراولپنڈی میں رہے گی، میگا ایونٹ کی ٹرافی کراچی میں 7 اور 8اکتوبر کو مختلف مقامات پر شائقین کی توجہ کا مرکز بنے گی۔

 یاد رہے کہ ٹرافی 27 اگست کو آئی سی سی اکیڈمی سے روانہ ہوئی تھی، اسے 21 ملکوں اور60 شہروں کا سفر مکمل کرکے 19 فروری کو انگلینڈ پہنچنا ہے۔ آئی سی سی ورلڈ کپ کا افتتاحی میچ آئندہ سال 30 مئی کو لندن کے اوول گراﺅنڈ میں میزبان انگلینڈ اور جنوبی افریقہ کے مابین کھیلا جائے گا، فائنل 14جولائی کو لندن کے لارڈز گراﺅنڈ میں کھیلا جائے گا۔

انعم کی تباہ کن باؤلنگ، بنگلہ دیشی ٹیم صرف 30رنز پر ڈھیر

انعم امین کی تباہ کن باؤلنگ کی بدولت پاکستان ویمن نے بنگلہ دیش ویمن ٹیم کو صرف 30رنز پر ٹھکانے لگا کر دوسرے ٹی20میچ میں 58رنز سے کامیابی حاصل کر لی۔

پہلا میچ بارش کی نذر ہونے کے بعد دوسرا ٹی20 بھی بارش کی وجہ سے تاخیر سے شروع ہوا اور میچ کو 14اوورز فی اننگز تک محدود کردیا گیا۔

بنگلہ دیش نے موسم اور وکٹ کی نمی کا فائدہ اٹھانے کے لیے پہلے باؤلنگ کا فیصلہ کیا جو ابتدائی طور پر کسی حد تک درست ثابت ہوا۔

پاکستانی وومن ٹیم مقررہ اوورز میں پانچ وکٹوں کے نقصان پر 88رنز بنا سکی، کپتان جویریہ خان 25 اور ناہیدہ خان 18رنز بنا کر نمایاں بلے باز رہیں۔

ہدف کے تعاقب میں بنگلہ دیشی بیٹنگ لائن تتر بتر نظر آئی اور کسی بھی بلے باز کے پاس پاکستانی باؤلرز خصوصاً انعم امین کی تباہ کن باؤلنگ کا کوئی جواب نہیں تھا۔

انعم امین کو میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا— تصویر بشکریہ ٹوئٹر
انعم امین کو میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا— تصویر بشکریہ ٹوئٹر

بنگلہ دیش کی پوری ٹیم صرف 30رنز بنا کر ڈھیر ہو گئی جو وومن انٹرنیشنل کرکٹ کی تاریخ میں ٹی20 کا چوتھا کم ترین اسکور ہے۔

ٹی20 کرکٹ میں کم ترین اسکور پر آؤٹ ہونے کا بدترین ریکارڈ موزمبیق کی ٹیم کے پاس ہے جو رواں سال نمیبیا کے خلاف 25رنز پر ڈھیر ہو گئی تھی۔

بنگلہ دیشی ٹیم کی بدترین کارکردگی کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ ان کی کوئی بھی بلے باز ڈبل فیگر میں بھی داخل نہ ہو سکی اور رومانہ احمد 9رنز بنا کر سب سے نمایاں بلے باز رہیں۔

پاکستان کی جانب سے مین آف دی میچ کا اعزاز حاصل کرنے والی انعم امین نے تباہ کن باؤلنگ کرتے ہوئے تین اوورز میں تین میڈان کرائے اور بغیر کوئی رن دیے تین وکٹیں حاصل کیں۔

اس کے علاوہ ندا ڈار، ایمن انور اور نشرح نسدھو نے دو، دو وکٹیں اپنے نام کیں۔

واضح رہے کہ رواں سال جون میں ملائیشیا کی ٹیم بھی پاکستان کے خلاف صرف تین رنز

قانونی جنگ میں بھارت نے دفاعی مورچہ سنبھال لیا

دبئی: آئی سی سی تنازعات کمیٹی میں جاری قانونی جنگ میں بھارت نے دفاعی مورچہ سنبھال لیا۔

بھارتی کرکٹ بورڈ نے 2014میں ’’بگ تھری‘‘ کی حمایت حاصل کرنے کیلیے پی سی بی کو 2015سے 2023 تک 8سال میں6باہمی سیریز کھیلنے کا لالی پاپ دیا تھا،ان میں سے 4کی میزبانی پاکستان کو کرنا تھی لیکن بعد ازاں ہر بار حکومتی اجازت نہ ملنے کا جواز دے کر مسلسل انکار کیا جاتا رہا، نقصان کے ازالے کیلیے پی سی بی نے آئی سی سی کی تنازعات کمیٹی سے رجوع کرتے ہوئے 447 کروڑ روپے ہرجانے کا دعویٰ کیا تھا۔

پیر کے روز دبئی میں ہیڈ کوارٹرز میں پی سی بی کے چیف آپریٹنگ آفیسر سبحان احمد مائیکل بیلوف کی سربراہی میں کام کرنیوالی کمیٹی کے سامنے پیش ہوئے، 2014میں معاہدہ کرنیوالے سابق چیئرمین بورڈ نجم سیٹھی نے بھی تفصیلات سے آگاہ کیا۔

گزشتہ روز سماعت کے دوسرے روز بی سی سی آئی نے اپنے ’’ٹرمپ کارڈ‘‘ کے طور پر سابق وزیر خارجہ سلمان خورشید کوپیش کیا، دیگر مصروفیات کی وجہ سے ان کا بیان سب سے پہلے ریکارڈ کیا گیا۔

بھارتی بورڈ کے ایک اعلیٰ عہدیدار نے نام نہ ظاہر کرنے کی شرط پر بتایا کہ سلمان خورشید کی کمیٹی میں آمد پی سی بی کیلیے بڑی حیرت کا باعث تھی،وہ توقع نہیں کررہے تھے کہ ایک سابق وزیر خارجہ بھی تنازع کے حوالے سے حقیقت واضح کرنے کیلیے پیش ہوسکتا ہے۔

سلمان خورشید نے کمیٹی کو بتایا کہ ممبئی حملوں کے بعد بھارتی ٹیم نے پاکستان کا دورہ کرنے سے کیوں گریز کیا،2014میں سونیا گاندھی کی سربراہی میں قائم اتحاد کی حکومت میں وزیر خارجہ نے بتایا کہ پڑوسی ملک میں کھیلنے کے سیکیورٹی خدشات پر ہم نے دنیا کی مختلف انٹیلی جنس ایجنسیز سے رابطہ کیا،دہشت گردوں کے متعدد حملوں کو دیکھتے ہوئے اس وقت ٹیم کو بھجوانا ممکن نہیں تھا۔

انھوں نے یہ موقف بھی دہرایا کہ جب تک بھارت میں سرحد پار سے دہشت گردی ختم نہیں ہوتی باہمی کرکٹ سیریز ممکن نہیں۔بھارت بورڈ عہدیدار نے سلمان خورشید کے کمیٹی کے سامنے اختیار کیے جانے والے موقف کی تفصیلات میڈیا کو جاری کیں، انھوں نے کہا کہ پی سی بی کے سارے کیس کی بنیاد سابق سیکریٹری بی سی سی آئی سنجے پٹیل کی جانب سے ہونے والی ایک صفحے کی ای میل ہے،ایک تو یہ ایم او یو نہیں لہذاکوئی قانونی حیثیت نہیں، دوسرے سنجے پٹیل نے بگ تھری کی حمایت کا تقاضا کیا تھا، پی سی بی نے اس کیخلاف ووٹ دیا۔

یاد رہے کہ بھارتی کرکٹ بورڈ نے دفاع کیلیے اپنے سابق صدر اور موجودہ چیئرمین آئی سی سی ششناک منوہر،سابق چیف ایگزیکٹیو آفیسر سندر رامن، سابق جنرل منیجر رتناکر شیٹی،سابق سیکریٹری سنجے پٹیل کے نام دیے تھے،ان سب کے نام اس تنازع سے کسی نہ کسی طور جڑے ہوئے ہیں، ابھی تک سلمان خورشید کا کمیٹی میں دیا گیا بیان سامنے آیا ہے، کمیٹی کی سماعت کا بدھ کوآخری روز ہوگا۔

Google Analytics Alternative