بین الاقوامی

امریکا نے شام پر مزید پابندیاں لگادیں

واشنگٹن ڈی سی: امریکا نے شام کے سرکاری عہدیداروں پر مزید اور وسیع تر پابندیاں عائد کرتے ہوئے شامی ادارے ’سائنٹفک اسٹڈیز اینڈ ریسرچ سینٹر‘ (ایس ایس آر سی) کے 271 ملازمین کے اثاثے منجمد کرنے کا حکم دے دیا ہے۔

غیر ملکی خبر ایجنسیوں کے مطابق امریکا کی جانب سے لگائی گئیں یہ پابندیاں ان کارروائیوں کے ردِعمل میں لگائی گئی ہیں جو شامی فوج نے چند ہفتے پہلے خان شیخون نامی قصبے کو بشارالاسد کے مخالفین کے قبضے سے آزاد کروانے کےلیے کی تھیں اور جن کے نتیجے میں 80 افراد ہلاک ہوئے تھے۔

امریکا نے الزام لگایا کہ اس حملے میں شامی فوج نے اعصابی گیس استعمال کی تھی اور اسی بات کو بنیاد بناتے ہوئے شامی فوج کے ’شعیرات‘ ہوائی اڈے پر حملہ بھی کردیاتھا لیکن شام اور امریکا میں تنازعہ یہیں پر نہیں رکا بلکہ گزشتہ روز امریکی وزارتِ خزانہ نے اعلان جاری کیا کہ اس نے ’ایس ایس آر سی‘ کے 271 ملازمین پر غیر روایتی ہتھیار ڈیزائن کرنے، بنانے اور فراہم کرنے کے جرم میں پابندیاں عائد کردی ہیں جن کی رُو سے ان کے اثاثے منجمد کردیئے گئے ہیں اور کوئی بھی امریکی ان سے کسی قسم کا لین دین نہیں کرسکے گا۔

امریکی وزیرِ خزانہ اسٹیون منوشین کا کہنا تھا کہ ’ایس ایس آر سی‘ بشارالاسد کو ’’سائنسی طور پر تقویت پہنچانے والا مرکز‘‘ ہے جہاں تیار کردہ خوفناک کیمیائی ہتھیاروں کے حملے میں بے قصور شہری، خواتین اور بچے اپنے قیمتی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے۔

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کی طلبا پر پھر فائرنگ، متعدد زخمی، جھڑپیں

سری نگر / نئی دہلی: مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسزکی فائرنگ سے متعدد کشمیری طلبا زخمی ہوگئے۔

سری نگر میں انتظامیہ نے ایک ہفتے تک جاری رہنے والی کشیدگی کے بعد دوبارہ اسکولز اور کالجز کھولے تو طالب علموں نے مظاہرہ شروع کردیا۔ پولیس نے مظاہرین کو روکنے کے لیے آنسو گیس اور واٹر کینن کا بھی استعمال کیا جس کے نتیجے میں متعدد طالب علم زخمی بھی ہوئے۔ طالب علموں نے بھی پولیس اور نیم فوجی اہلکاروں پر پتھراؤ کیا۔ طلبا آزادی کے حق میں نعرے بازی کررہے تھے۔ بھارتی فورسز نے متعدد طلباکو گرفتار بھی کرلیا۔

ادھر بھارتی فوج کے حملے میں زخمی ہونے والی لڑکی کواسپتال پہنچانے کی  فوٹو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی۔ مقبوضہ کشمیر میں کالج طالبات کے احتجاج میں بھارتی فوج کے حملے میں 18 سالہ طالبہ زخمی ہوئی تو فوٹو جرنلسٹ نے کیمرہ ایک طرف رکھا، لڑکی کواسپتال پہنچایااور سوشل میڈیا پر ہیرو بن گیا۔

دریں اثنا گائے کے نام نہاد محافظوں کی مقبوضہ کشمیر میں کھلے عام غنڈہ گردی،مشتعل افراد نے خانہ بدوشوں پر حملہ کرکے سلاخوں سے تشدد کیا گیا۔خاتون رحم کی بھیک مانگتی رہی اور پولیس خاموش تماشائی بنی رہی۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق گائے کے نام نہاد محافظوں کی غنڈہ گردی بھارت سے نکل کر مقبوضہ کشمیر تک پہنچ گئی ، خانہ بدوش گھرانہ اپنے مویشیوں کے ساتھ سفر کر رہا تھا کہ اچانک گائے کے نام نہاد محافظوں نے ان پر حملہ کردیا۔ آپے سے باہر افراد نو سال کی بچی سمیت 7 افراد پر ٹوٹ پڑے، جن میں خواتین بھی شامل تھیں۔

چیئرمین سید علی گیلانی نے حیات پورہ چاڈورہ میں بھارتی فورسز کے ہاتھوں شہید ہونے والے نوجوانوں کو شاندار خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ ریاست میں قیمتی انسانی جانوں کے اتلاف کے لیے بھارت کی غیر حقیقت پسندانہ پالیسی ذمے دار ہے۔

دوسری جانب پولیس حکام کا کہنا ہے کہ عبدالغنی ڈار کو سری نگر کے علاقے میں مشتبہ افراد نے اس وقت فائرنگ کرکے قتل کیا جب وہ اپنی کار میں سوار تھے۔ پولیس کا دعویٰ ہے کہ غنی کو مسلح شدت پسندوں نے ہلاک کیا ہے تاہم کسی مسلح تنظیم نے تاحال ہلاکت کی ذمے داری قبول نہیں کی۔ عبدالغنی ڈار کی ہلاکت کے بعد وادی کی صورت حال مزید کشیدہ ہوگئی ہے۔

علاوہ ازیں مقبوضہ کشمیر کی وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی نے نئی دہلی میں کہا کہ بات چیت کے بغیر کشمیر کے مسئلے کا حل ناممکن ہے۔ انھوں نے پیر کو دہلی میں وزیر اعظم نریندر مودی سے ملاقات کے بعد پریس کانفرنس میں کہا کہ جب اٹل بہاری واجپائی وزیر اعظم تھے اور ایل کے ایڈوانی ان کے نائب تھے اس زمانے میں انھوں نے حریت سے بھی بات چیت کی تھی۔ اور اٹل بہاری واجپائی نے جہاں بات ختم کی تھی وہیں سے بات شروع ہونی چاہیے۔

محبوبہ مفتی نے ملاقات کے دوران ہونے والی گفتگو کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ انھوں نے وزیر اعظم پر زور دیا کہ وہ انڈس واٹر ٹریٹی کا مسئلہ سلجھائیں کیونکہ اس کی وجہ سے جموں کشمیر کو ہر سال20 ہزار کروڑ روپے کا نقصان ہوتا ہے۔ انھوں نے بتایا کہ مودی نے انھیں یقین دہانی کرائی ہے کہ اس کے متعلق کوئی نہ کوئی حل تلاش کیا جائے گا۔

وزیر اعلی محبوبہ مفتی نے کشمیر میں پتھراؤ روکنے اور امن و امان بحال کرنے کے متعلق ایک سوال کے جواب میں کہا کہ آج ہماری یونیفائڈ کمانڈ کے ساتھ میٹنگ ہے جس میں اس پر غور کریں گے۔ انھوں نے واضح کیا کہ پتھربازی کی کئی وجوہات ہیں، کچھ نوجوان مایوس ہیں، خفا ہیں اور ناراض ہے اور دوسرا گروپ وہ ہے جسے جان بوجھ کر اکسایا جاتا ہے۔ ان سب پر آج بات ہوگی اور ہم کوئی نہ کوئی راستہ ضرور نکالیں گے۔ انھوں نے بی جے پی اور پی ڈی پی کے درمیان کشیدگی کے معاملے پر کہا کہ اسے دور کر لیا جائے گا۔

اسرائیلی جیلوں میں فلسطینیوں کی بھوک ہڑتال جاری

اسرائیلی جیلوں میں زیادتیوں کے خلاف فلسطینی قیدیوں کی بھوک ہڑتال اور مقبوضہ علاقوں میں مظاہروں کا سلسلہ جاری ہے۔

اسرائیل کی جیلوں میں جبرو تشدد اور میڈیکل سہولیات نہ ملنے پر فلسطینی قیدیوں نے 9دن سے بھوک ہڑتال کررکھی ہے جبکہ مغربی کنارے میں اسرائیل حکومت کے ٕخلاف دوسرے روز بھی احتجاجی مظاہرے ہوئے ۔

اسرائیلی فورسز نےچیک پوسٹ کی طرف بڑھتے مظاہرین پرگولیاں چلادیں ، جس سے متعدد مظاہرین زخمی ہوگئے ۔

اسرائیل کی جیلوں میں تقریباً ساڑھے چھ ہزار فلسطینی قید ہیں جن میں سے 500پر کوئی الزام نہیں ہے۔

امریکا کاروس پر طالبان کو ہتھیار فراہم کرنے کاالزا م

امریکا نے روس پر طالبان کو ہتھیار فراہم کرنے کاالزا م عائد کیاہے ، امریکی وزیردفاع کا کہنا ہے کہ روس کا سامنا کریں گے۔

مزار شریف میں افغان طالبان کے بڑے حملے پر امریکا اور افغانستان شدید پریشانی میں مبتلاہیں، ہنگامی دورے پر افغانستان آئے امریکی وزیر دفاع نے میڈیا بریفنگ کے دوران اس الزام کی تردید نہیں کی کہ روس طالبان کو ہتھیار فراہم کررہاہے۔

انہوں نے کہا کہ بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی پر امریکا روس کا سامنا کرے گا، روس اس سے پہلے بھی طالبان کو ہتھیار فراہم کرنے کی تردید کرچکا ہے ۔

کلبھوشن تک قونصلر رسائی نہ دے کر کسی معاہدے کی خلاف ورزی نہیں کی، عبدالباسط

نئی دلی: بھارت میں تعینات پاکستانی ہائی کمشنر عبدالباسط نے کلبھوشن یادیو تک قونصلر رسائی نہ دینے پر بھارت کی جانب سے دو طرفہ معاہدے کی خلاف ورزی کے بیان کو مسترد کردیا۔

بھارتی خبر رساں ادارے پریس ٹرسٹ آف انڈیا کو دیئے گئے انٹرویو میں پاکستانی ہائی کمشنر عبدالباسط نے کہا کہ دوطرفہ قونصلر رسائی معاہدے کے مطابق سیاسی اور سیکیورٹی معاملات سے متعلق کیسز میں فیصلہ میرٹ پر کیا جائے گا۔ انہوں نے بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کو ایران سے اغوا کیے جانے کے بھارتی دعوے کو مسترد کرتے ہوئے کہا  کہ کلبھوشن کو بلوچستان سے پکڑا گیا جسے جاسوسی کے الزام میں سزا دی گئی ہے۔

عبدالباسط نے کہا کہ کلبھوشن یادیو نے کئی سالوں تک پاکستان میں سفر کیا اور اس کے پاس دو بھارتی پاسپورٹ ہیں جن میں سے ایک جعلی ہے۔ انہوں نے بھارت کی جانب سے کلبھوشن کے ٹرائل کو غیر منصفانہ اور خفیہ رکھنے کے بھی دعوے کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ کلبھوشن کا ٹرائل ملٹری کورٹ سے ہوا کیونکہ اس کا کسی سول کورٹ سے ٹرائل کرانا ناممکن تھا۔

پاکستانی ہائی کمشنر کا کہنا تھا کہ کلبھوشن کی سزائے موت کا فیصلہ پاکستان اور بھارت کے درمیان 2008 کے معاہدے اور قانون کے مطابق ہوا۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے کسی چیز کی خلاف ورزی نہیں کی، ہم قانونی کارروائی کررہے ہیں اور معاہدے کے مطابق ہی سخت فیصلہ کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ کلبھوشن یادیو اپنی سزا کے خلاف اپیل کرسکتا ہے اور اپیلٹ کورٹ میں بھی جاسکتا ہے، اگر فیصلہ برقرار رہے تو آرمی چیف اور وزیراعظم سے رحم کی اپیل بھی کرسکتا ہے۔ کلبھوشن کی اس کے اہل خانہ سے ملاقات سے متعلق سوال پر پاکستانی ہائی کشمنر نے اسے قبل از وقت قرار دیتے ہوئے اس پر بات کرنے سے بھی گریز کیا۔

پیرس: پولنگ کے بعد احتجاج، متعدد گاڑیاں جلادی گئیں

فرانسیسی میڈیا کے مطابق پہلے مرحلے کے نتائج سامنے آنے کے بعد احتجاج کا سلسلہ شروع ہوا ۔ مظاہرین نے قوم پرست امیدوار ماری لی پین کی امیگریشن اور نسل پرستانہ پالیسیوں کے خلاف احتجاج کیا۔

مظاہرین کو روکنے کے لیے پولیس کی جانب سے آنسو گیس کی شیلنگ بھی کی گئی۔ مشتعل مظاہرین نے متعدد گاڑیوں کو آگ لگادی جبکہ پولیس نے ہنگامہ آرائی کے الزام میں متعدد افراد کو گرفتار بھی کیا ہے ۔

فرانس میں صدارتی انتخاب: ایمانیول اور ماری لی پین میں سخت مقابلہ

فرانسیسی وزارت داخلہ کے مطابق 33.2 ملین ووٹوں کی گنتی مکمل کر لی گئی جس میں 39 سالہ امینیول میک غوں23.82 فیصدکے ساتھ پہلے نمبر پر ہیں جبکہ 48 سالہ ماری لی پین 21.58فیصد ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہیں۔

میک غوں کاروباری سرگرمیوں کے حامی ہیں جب کہ لی پین تارکین وطن خصوصاً مسلمان ملکوں سے لوگوں کی آمد کو روکنا چاہتی ہیں ۔ وہ فرانس کے یورپ یونین سے علیحدہ ہو جانے کی بھی وکالت کرتی رہی ہیں ۔

صدارتی انتخاب کے دوران دہشت گردانہ واقعات کے تناظر میں سیکورٹی انتہائی سخت تھی اور ملک بھر میں تقریبا پچاس ہزار پولیس اہلکار اور سات ہزار فوجی تعینات کیے گئے تھے ۔

شاہ سلمان نے اپنے بیٹے کو امریکا میں سفیر مقرر کر دیا

سعودیہ عرب کی پریس ایجنسی کے مطابق پرنس عبد اللہ بن فیصل بن ترکی کو امریکی سفارتکار کے عہدے سے ہٹا کر شاہ سلمان نے اپنے بیٹے شہزادہ خالدبن سلمان بن عبد العزیز کو اس عہدے پر مقررکیا ہے ۔

پرنس عبد اللہ بن فیصل تقریباً ایک سال سے زیادہ عرصے تک امریکا میںسعودی سفیر کے عہدے پرفائز رہے ۔دوسری جانب نئے سعودی سفیر شہزادہ خالد امریکہ میں سفارتکار تعینات ہونے سے پہلے سعودی ائیر فورس میں فائٹر پائلٹ کے فرائض سرانجام دے رہے تھے اور انہوں نے حوثی باغیوں کے خلاف آپریشن میں بھی حصہ لیا۔

العربیہ نیوز کے مطابق شہزادہ خالد ، نائب ولی عہد اور وزیر دفاع شہزاہ محمد بن سلمان کے چھوٹے بھائی ہیں۔ انہوں نے امریکی ریاست مسیسی پی کی کولمبس ائر بیس سے ہوابازی کی تربیت مکمل کی ہے۔ وہ سعودی فضائیہ میں شامل جدید ترین لڑاکا F-15 کے ہواباز کے طور پر داعش کی بیخ کنی کے لیے بنائے گئے بین الاقوامی اتحاد کے پلیٹ فارم سے یمن میں فضائی کارروائیوں میں شریک رہے ہیں۔

Google Analytics Alternative