بین الاقوامی

انڈونیشیا میں طیارہ گرکر تباہ ہونے سے تمام مسافر ہلاک، بچہ محفوظ رہا

جکارتا:انڈونیشیا میں چھوٹا مسافر طیارہ گر کر تباہ ہوگیا جس کے نتیجے میں 8 افراد ہلاک ہوگئے جب کہ معجزانہ طور پر ایک بچہ محفوظ رہا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق انڈونیشیا کے صوبے پاپوآ کے پہاڑی علاقے میں ایک چھوٹا مسافر طیارہ گر کر تباہ ہو گیا جس کے نتیجے میں 8 افراد ہلاک ہو گئے ۔ خوش قسمتی سے 12 سالہ بچہ اس ہولناک حادثے میں محفوظ رہا جسے قریبی اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔ طیارے میں 9 افراد سوار تھے جن میں 2 پائلٹس شامل تھے۔

سوئس ساختہ کمرشل طیارہ ’پلاٹس پی سی- 6‘ پرواز بھرنے کے 45 منٹ بعد لاپتہ ہو گیا تھا۔ انڈونیشیا کے فوجی ریسکیو اہلکاروں کو جہاز کا ملبہ اوکسیبل ایئرپورٹ کے نزدیک ایک پہاڑی علاقے میں ملا۔ ریسکیو اہلکاروں نے معجزانہ طور پر بچ جانے والے لڑکے کو فوری طبی امداد مہیا کی۔

بچہ ہوش میں ہے اور اس کا نام جمیدی بتایا جاتا ہے تاہم صدمے کی کیفیت میں ہے اور واقعے کی تفصیلات بتانے سے قاصر ہے۔ واقعے کی وجوہات جاننے کے لیے تحقیقات شروع کردی گئی ہیں۔ عینی شاہدین کے مطابق جہاز گرنے سے قبل زوردار دھماکوں کی آواز بھی آئی۔

واضح رہے گنجان آباد جزیروں پر مشتمل انڈونیشیا میں بری، بحری اور فضائی سفر کے محفوظ ذرائع نہایت کم ہیں ۔ حفاظتی اقدامات نہ ہونے کے برابر ہیں جس کے باعث مختلف سفری حادثات میں سالانہ سیکڑوں افراد لقمہ اجل بن جاتے ہیں۔

تیونس میں وراثت سے متعلق اسلامی قانون میں تبدیلی پر ہزاروں مسلمان سراپا احتجاج

تیونس سٹی: وراثت میں مرد اور خواتین کو مساوی حصہ دینے کے قانون کے خلاف تیونس میں ہزاروں مسلمان مظاہرین نے پارلیمنٹ کے سامنے احتجاج کیا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق تیونس میں وراثت کے غیر اسلامی قانون کے نفاذ کے خلاف ہزاروں مسلمان سڑکوں پر نکل آئے۔ مظاہرین نے پارلیمنٹ ہاؤس کے سامنے دھرنا دیا اور سیاہ قانون پر حکومت کے خلاف شدید نعرے بازی کی۔ مقررین نے وراثت میں مساوات کے قانون کو واپس لینے کا مطالبہ کیا۔

صدر سید ایسبسی کل بروز پیر تیونس میں سرکاری طور پر منائے جانے والے یوم خواتین کے موقع پر ملک میں رائج وراثت کے قانون میں کی جانے والی ترمیم کا باضابطہ اعلان کریں گے۔ جس کے بعد وراثت میں خواتین کا حصہ بھی مردوں کے برابر ہو جائے گا۔

قبل ازیں تیونس کے قانونِ وراثت میں خواتین کو مردوں کے برابر حصہ دینے پر پابندی تھی اور خلاف ورزی کرنے والوں کو سزائے موت دی جا سکتی تھی تاہم موجودہ صدر نے قانون میں ترمیم کرتے ہوئے نہ صرف سزائے موت ختم کردی بلکہ مرد و زن کیلیے وراثت میں برابر کا حصہ دینے کا اختیار بھی دے دیا۔

واضح رہے کہ تیونس کے صدر نے 2017 میں سماجی اصلاحات کے تحت مردو زن کےدرمیان میراث میں عدم مساوات کے سابقہ قانون کو ختم کر کے شہریوں کو میراث میں بیٹوں اور بیٹیوں کو برابر حصہ دار قرار دینے کی اجازت دی تھی جس کے نفاذ کا اعلان کل کیا جانا ہے۔

واضح رہے کہ اسلامی قانون اور قرآنی تعلیمات کے مطابق والدین کی وراثت میں بیٹے کا حصہ بیٹی سے دگنا ہوتا ہے۔

سری لنکا کی آخری ون ڈے میں جیت، سیریز جنوبی افریقہ کے نام

سری لنکا نے ایک روزہ سیریز کے پانچویں اور آخری میچ میں جنوبی افریقہ کو 178 رنز سے شکست دے دی جبکہ جنوبی افریقہ نے ابتدائی 3 میچوں میں کامیابی کی بدولت سیریز 3-2 سے جیت لی۔

کولمبو میں کھیلے گئے سیریز کے آخری ایک روزہ میچ میں سری لنکا نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا اور اسکور بورڈ میں ایک اچھا مجموعہ سجا دیا۔

سری لنکا کے دونوں اوپنرز نیروشان ڈیکویلا اور اپل تھرنگا نے 50 رنز کی شراکت کی تاہم تھرنگا 19 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے جس کے بعد کوسل پریرا بھی زیادہ دیر وکٹ پر نہ ٹھہر سکے اور 8 رنز بنا کر واپس لوٹ گئے۔

نیروشان ڈیکویلا اور مینڈس نے تیسری وکٹ کی شراکت میں اسکور کو 114 رنز تک پہنچایا مگر ڈیکویلا 43 رنز کی اننگز کھیلنے کے بعد آؤٹ ہوئے۔

کپتان اینجیلو میتھیوز 3 بلے بازوں کے آؤٹ ہونے کے بعد میدان میں اترے اور ناقابل شکست اننگز کھیلی تاہم مینڈس 142 کے اسکور پر 38 رنز بنا کر ان کا ساتھ چھوڑ گئے۔

شناکا نے 21، تھیساراپریرا 13 اور دھنانجیا نے 5 رنز بنا کر میتھیوز کا ساتھ دیا۔

سری لنکا نے مقررہ اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 299 رنز بنائے۔

میتھیوز نے ناقابل شکست 97 رنز بنائے اور صرف 3 رنز کے فرق سے اپنی سنچری مکمل نہیں کر پائے۔

جنوبی افریقہ کو ہدف کے تعاقب میں پہلا نقصان تجربہ کار بلے باز ہاشم آملہ کی صورت میں اٹھانا پڑا جب وہ صفر پر پویلین لوٹ گئے تاہم کوئنٹن ڈی کوک اور میکرام نے 31 رنز جوڑے۔

میکرام نے جارحانہ انداز میں 20 رنز بنائے جس کے بعد ہینڈرکس صفر اور کلاسان 3 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

کوئنٹن ڈی کوک کے علاوہ جنوبی افریقہ کا کوئی بھی بلے باز نمایاں کارکردگی نہیں دکھا سکا اور پوری ٹیم 121 رنز پر آؤٹ ہو ئی اور میچ 178 رنز کے بھاری مارجن سے ہار گئی۔

جنوبی افریقہ کی جانب سے ڈی کوک نے 54 رنز بنائے۔

سری لنکا کے اکیلا دانانجیا نے 6 وکٹیں حاصل کیں۔

خیال رہے کہ جنوبی افریقہ نے سیریز کے ابتدائی تینوں میچوں میں کامیابی حاصل کرکے سیریز اپنے نام کرلی تھی جبکہ ٹیسٹ سیریز میں انھیں شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

میچ میں اچھی باؤلنگ پر اکیلا دانانجیا کو میچ کا بہترین کھلاڑی اور جنوبی افریقہ کے جے پی ڈومینی کو سیریز کے بہترین کھلاڑی کا ایوارڈ دیا گیا۔

ملائیشیا، انڈونیشیا، برونائی اور یونان میں ذوالحجہ کا چاند نظر نہیں آیا

مختلف ممالک میں ذوالحجہ کا چاند دیکھنے کے لیے اجلاس ہوا جس کے بعد ملائیشیا، انڈونیشیا، برونائی دارالسلام اور یونان میں چاند نظر نہ آنے کا باضابطہ اعلان کردیا گیا۔

عرب اخبار کی رپورٹ کے مطابق ان ممالک میں ہفتے کو چاند نظر نہیں آیا جس کے بعد سرکاری طور پر اعلان کیا گیا کہ یکم ذوالحجہ 13 اگست بروز پیر اور عید الاضحیٰ 22 اگست کو منائی جائے گی۔

سعودی عرب نے پہلے ہی عید الاضحیٰ کے لیے 11 روزہ سرکاری تعطیلات کا اعلان کردیا ہے جبکہ متحدہ عرب امارات نے 5 یوم کی تعطیلات کا اعلان کیا ہے تاہم ان دونوں ملکوں کی جانب سے سرکاری سطح پر چاند کی رویت کا کوئی اعلان ابھی تک نہیں کیا گیا ہے۔

پاکستان میں کل چاند نظر آنے کا امکان

پاکستان میں محکمہ موسمیات نے امکان ظاہر کیا ہے کہ پاکستان میں اسلامی مہینے ذوالحجہ کا چاند 12 اگست نظر آسکتا ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق چاند کی پیدا ئش آج دوپہر 2 بجکر 59 منٹ پر ہوچکی ہے اور فلکیاتی پیرامیٹرز کے مطابق ذوالحجہ کا چاند نظر آنے کا قوی امکان 12 اگست کی شام کو ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق کل ملک کے بیشتر حصوں میں مطلع کبھی صاف اور کبھی جزوی طور پر ابر آلود رہنے کا امکان ہے۔

چاند کی رویت کا حتمی اعلام مرکزی رویت ہلال کمیٹی شہادتوں کا جائزہ لینے کے بعد کرے گی۔ اگر کل یعنی 12 اگست کو چاند نظر آگیا تو پاکستان میں عیدالاضحیٰ 22 اگست بروز بدھ ہوگی۔

عید الاضحیٰ ذوالحجہ کی 10 تاریخ کو منائی جاتی ہے، اس دن مسلمان حج بھی کرتے ہیں جبکہ سنت ابراہیمی پر عمل کرتے ہوئے جانوروں کی قربانی کا فریضہ بھی سرانجام دیتے ہیں۔

امریکا میں ہائی جیک ہونے والا طیارہ سمندر میں گر کر تباہ

واشنگٹن: امریکا میں نجی ائرلائن کا مسافر طیارہ ہائی جیکنگ کے بعد سمندر میں گر کر تباہ ہوگیا۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق واشنگٹن کے شہر سیئٹل کے ٹاکوما ائرپورٹ پر الاسکا ائرلائن کے مسافر طیارے نے کنٹرول ٹاور کی اجازت کے بغیر اڑان بھری تو حکام کی دوڑیں لگ گئیں اور سب میں خوف کی لہر دوڑ گئی۔

کسی کو دہشت گردی کا خدشہ ستانے لگا تو کسی کو نائن الیون کا واقعہ یاد آگیا۔ فوری طور پر شہر بھر میں ہائی الرٹ اور تمام پروازوں کو گراؤنڈ کردیا گیا جبکہ امریکی فضائیہ کی مدد طلب کرلی گئی۔ خوش قسمتی سے طیارہ خالی تھا اور اس میں کوئی مسافر سوار نہ تھا۔

امریکی ائرفورس نے فی الفور اپنے ایف 15 جنگی جہازوں کو روانہ کردیا جنہوں نے کمرشل طیارے کا تعاقب کرکے گھیرے میں لے لیا۔ کنٹرول ٹاور نے ہائی جیکر سے رابطہ کرکے اس کی شناخت پوچھی اور بلااجازت طیارہ اڑانے کا مقصد پوچھا۔

رابطہ پر پتہ چلا کہ ہائی جیکر طیارے کی مالک کمپنی الاسکا ائرلائنز کا اپنا ملازم اور طیارے کا انجینئر ہے۔ ایف 15 جنگی طیاروں کے پائلٹس اور کنٹرول ٹاور حکام نے طیارہ چرانے والے کو جہاز کا رخ واپس موڑنے اور اتارنے کا حکم دیا۔ تاہم مسافر طیارے نے کچھ دیر پرواز کرنے کے بعد قلابازیاں کھائیں اور پھر کیٹرون آئی لینڈ کے مقام پر سمندر میں گر کر تباہ ہوگیا، جس کے نتیجے میں اس میں سوار ہائی جیکر بھی ہلاک ہوگیا۔

حکام کے مطابق ہائی جیکر مقامی تھا جس کا نام رچ اور عمر 29 سال تھی جبکہ وہ واشنگٹن کے علاقے پیئرس کاؤنٹی کا رہائشی تھا۔ امریکی حکام نے یہ بھی کہا کہ یہ دہشت گردی نہیں بلکہ خودکشی کا واقعہ نظر آتا ہے، پائلٹ کی کم مہارت اور اسٹنٹ دکھانے کی کوشش طیارہ گرنے کی وجہ بنی ہے۔ امریکی سیکیورٹی اداروں نے تحقیقات شروع کردی ہیں کہ یہ واقعہ کس طرح پیش آیا اور ہلاک شدہ ملازم کے کیا مقاصد تھے۔

ہائی جیکر کی گفتگو

امریکی میڈیا پر ہائی جیکر اور کنٹرول ٹاور حکام کی گفتگو بھی سامنے آئی ہے جس سے خودکشی کے پہلو کو تقویت ملتی ہے۔ ہائی جیکر نے کہا کہ بہت سارے لوگ مجھے سے محبت کرتے ہیں اور انہیں میری اس حرکت پر شرمندگی و مایوسی ہوگی، میں سب سے معافی مانگتا ہوں، میں ایک ٹوٹا ہوا انسان ہوں۔ دوران گفتگو رچ نے ازراہ مذاق یہ بھی کہا کہ اگر میں کامیابی سے طیارے کو نیچے اتار لوں تو کیا الاسکا ائرلائن مجھے پائلٹ کی ملازمت دے گی۔

بھارت میں ایک بندر کی گھر میں گھس کر بچہ ‘چرانے’ کی کوشش

اگر آپ کو لگتا ہے کہ چوری صرف انسان کرسکتے ہیں تو آپ غلط ہیں کیونکہ اب جانور بھی یہ کام کرنے لگے ہیں، ایسا ہی ایک واقعہ بھارتی ریاست کرناٹک کے ایک گاؤں میں پیش آیا، جہاں ایک بندر نے ایک معصوم بچے کو ‘چرانے’ کی کوشش کی۔

مرر کی ایک رپورٹ کے مطابق ریاست کرناٹک کے ایک گاؤں میں ایک بندر بھاگتے بھاگتے ایک گھر میں گھس آیا اور ایک چھوٹے بچے کو اٹھالیا، یہ منظر دیکھ کر بچے کی والدہ اور دیگر اہلخانہ پریشان ہوگئے۔

بچے کو  بندر سے چھڑوانے کے لیے گھر والوں نے بہت کوشش کی لیکن اُس نے بچے کو زمین پر لٹا دیا اور اس کو مضبوطی سے پکڑا رہا۔

بچے کو بچانے کے لیے جب لوگ آگے بڑھتے تو بندر ان پر حملہ کرتا، یہاں تک کہ بچے کو بچانے کی کوشش کرنے پر بندر نے اس کی والدہ کا دوپٹہ بھی کتر ڈالا۔

لوگوں نے سوچا کہ بندر شاید بھوکا ہے، یہی وجہ ہے کہ اس کے لیے کھانے پینے کی اشیاء بھی پیش کی گئیں، لیکن وہ تب بھی ٹس سے مس نہ ہوا۔

اس واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر بھی وائرل ہوگئی، جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ بندر سے بچے کو چھڑوانے کے لیے ہر ممکن کوشش کی جارہی ہے لیکن وہ بچے کو پکڑے بضد ہے۔

بعد ازاں ایک شخص نے بندر کا دھیان بٹایا تاکہ وہ بچے کو چھوڑ دے اور جیسے ہی بندر پیچھے مڑا بچے کو زمین سے اٹھا لیا گیا۔

 دوسری جانب اس پورے عرصے میں بچہ اپنی ہی دنیا میں مگن کبھی مسکراتا اور کبھی روتا رہا۔

برطانیہ کی عسکری فیکٹری میں دھماکا، ایک شخص ہلاک

برطانیہ کے علاقے سیلسبری میں قائم عسکری سازوسامان تیار کرنے والی فیکٹری میں دھماکے سے ایک شخص ہلاک جبکہ دوسرا شدید زخمی ہوگیا۔

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کے مطابق دھماکے کے بعد فیکٹری کی عمارت میں آگ بھڑک اٹھی جس کے بعد ہنگامی بنیادوں پر امدادی خدمات فراہم کرنے والے اداروں کو طلب کرلیا گیا۔

اس حوالے سے پولیس ذرائع کا کہنا تھا کہ دھماکے کے بعد ایک شخص موقع پر ہی ہلاک ہوگیا جبکہ دوسرے کو شدید زخمی حالت میں ہسپتال منتقل کردیا گیا۔

واقعہ برطانوی وقت کے مطابق شام 5 بجے پیش آیا، آخری اطلاعات موصول ہونے تک ہلاک ہونے والے شخص کے لواحقین سے رابطہ کرنے کی کوشش جاری تھی۔

پولیس ترجمان کا کہنا تھا کہ واقعے کے بعد فیکٹری میں لگنے والی آگ پر قابو پالیا گیا، اور اب مقامی آبادی کو اس سے کوئی خطرہ نہیں ہے۔

ذرائع ابلاغ کی رپورٹس کے مطابق واقعے کے بعد علاقے میں سخت خوف کی فضا پھیل گئی تھی جبکہ علاقہ مکینوں کو گھروں میں رہنے کی ہدایت بھی جاری کی گئی۔

فیکٹری کے مالک چرمنگ گروپ کے بزنس ڈائریکٹر کا کہنا تھا کہ دھماکے کے بعد متاثرہ جگہ کو فوری طور پر خالی کروا کر صورتحال معمول پر لائی گئی، جبکہ واقعے کی وجوہات جاننے کے لیے تحقیقات کا بھی آغاز کردیا گیا۔

اس کے ساتھ انہوں نے متاثرہ خاندانوں سے بھی ہمدردی کا اظہار کیا۔

دوسری جانب ولٹشائر پولیس اور ہیلتھ اینڈ سیفٹی ایگزیکٹو کی جانب سے بھی وقوعہ کی تفتیش شروع کردی گئی۔

انڈونیشیا میں زلزلے سے ہلاکتوں کی تعداد 380 ہو گئی

جکارتا: انڈونیشیا میں سیاحت کے لیے مشہور جزیرے لومبوک میں زلزلے سے ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد 380 ہو گئی ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق 29 جولائی کو انڈونیشیا کے جزیرے بالی کے برابر میں واقع ایک اور سیاحتی جزیرے لومبوک میں آنے والے زلزلے میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد 380 ہو گئی ہے جب کہ 3 لاکھ سے زائد افراد بے گھر ہو گئے ہیں۔ امددی کام تاحال جاری ہے اور ملبے تلے دبی مزید لاشیں برآمد ہونے کا بھی امکان ہے۔

امریکی جیولوجیکل سروے کے مطابق زلزلے کی شدت ریکٹر اسکیل پر 7 اعشاریہ صفر ریکارڈ کی گئی تھی جب کہ اس کی گہرائی 10 کلومیٹر زیر زمین تھی۔ زلزلے کی وجہ سے متعدد عمارتوں اور گھروں کو نقصان پہنچا جب کہ بیرون ملک سے آنے والے سیاح اپنے وطن روانے ہو گئے ہیں۔

انڈونیشیا کی وزارت صحت کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ زلزے سے متاثرہ 500 سے زائد افراد کو مختلف اسپتالوں میں لایا گیا ہے جن میں سے 79 افراد کی حالت نازک بتائی جارہی ہے جب کہ 100 سے زائد زخمیوں کو طبی امداد کے بعد گھر جانے کی اجازت دے دی گئی تھی۔

زلزلے کی وجہ سے جزیرے پر نظام زندگی معطل ہوکر رہ گیا تھا، متعدد عمارتوں اور گھروں کو نقصان پہنچا اور بجلی کا نظام معطل ہوگیا تھا۔ ساحل سمندر اور دیگر سیاحتی مقامات سے سیاحوں کو محفوظ مقام پر منتقل کیا گیا جب کہ کئی دیہات مکمل طور پر تباہ ہوگئے ہیں۔

Indoneshia-earth-quick-lombok-3

دوسری جانب انڈونیشین ڈیزاسٹر مینجمنٹ ایجنسی نے زلزلے کے بعد سونامی کی وارننگ جاری کرتے ہوئے امدادی اداروں کو الرٹ رہنے کی ہدایت کردی تھی۔ تاہم جزیرے میں آفٹر شاکس کے علاوہ کوئی بڑا حادثہ رونما نہیں ہوا۔ زلزلے کے جھٹکے برابر میں واقع جزیرے بالی پر بھی محسوس کیے گئے تاہم وہاں شدت کم تھی۔

Indoneshia-earth-quick-lombok-2

زلزلے کے جھٹکے کے حوالے سے مقامی افراد نے ٹوئٹر پر لکھا  کہ انہوں نے کچھ دیر قبل زلزلے کے زبردست جھٹکے محسوس کیے اور ان جھٹکوں کا دورانیہ 15 سیکنڈ سے زائد تھا۔

واضح رہے کہ بالی کے مشرق میں واقعے اس جزیرے لومبوک میں گزشتے ہفتے بھی 6 اعشاریہ 4 شدت کے زلزلے کے باعث 16 افراد ہلاک اور سیکڑو ں زخمی ہوگئے تھے۔

Google Analytics Alternative