بین الاقوامی

حوثی باغیوں کی جانب سے صوبہ مکہ پر داغے گئے دو میزائلوں کو مار گرایا، سعودی عرب

ریاض: سعودی عرب کے ایئر ڈیفنس نے یمن کے حوثی باغیوں کی جانب سے داغے گئے 2 بیلسٹک میزائل مار گرائے ہیں جن میں سے ایک میزائل کا ہدف صوبہ مکہ اور دوسرے کا رخ جدہ تھا۔

سعودی پریس ایجنسی کے مطابق ملکی ایئر ڈیفنس نے بروقت ردعمل دیتے ہوئے حوثی باغیوں کی جانب سے داغے گئے 2 بیلسٹک میزائلوں کو فضا میں ہی تباہ کر کے ناکارہ بنادیا، ان میں سے ایک میزائل کو صوبہ مکہ  کی جانب داغا گیا تھا جب کہ دوسرا میزائل حملہ جدہ کی جانب کرنے کی کوشش کی گئی۔

یمن میں اتحادی افواج کے ترجمان نے بتایا کہ دونوں میزائلوں کو جدہ اور طائف کی حدود میں مار گرایا تاہم واشنگٹن میں واقع سعودی سفارت خانے کی ٹوئٹ میں دونوں میزائلوں کو مکہ صوبے کی حدود میں نشانہ بنانے کا دعویٰ کیا گیا۔

قبل ازیں عرب نشریاتی ادارے ‘العریبیہ ٹی وی’ نے دعویٰ کیا تھا کہ مار گرایا جانے والا ایک میزائل مکہ کی جانب پرواز کر رہا تھا تاہم حوثی باغیوں کے ترجمان یحیٰ ساریہ نے سعودی دعوے کی سخت الفاظ میں تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ مکہ کی جانب کوئی میزائل فائر نہیں کیا گیا۔ سعودی حکومت عوام کی ہمدردی حاصل کرنے کیلیے جھوٹا دعویٰ کر رہی ہے۔

دوسری جانب حوثی باغیوں کے ترجمان یحیٰ ساریہ نے اپنی فیس بک پوسٹ میں مزید لکھا کہ حوثی باغیوں نے سعودی عرب کے علاقے نجران کے ہوائی اڈے پر کامیاب حملہ کیا، باغیوں کے ٹی وی چینل ‘المسیرۃ’ نے تباہ حال ہوائی اڈے پر آگ لگنے کی فوٹیجز دکھائیں اور سعودی اتحاد نے صوبہ نجران میں غیر فوجی تنصیب پر ڈرون حملے کی تصدیق کی ہے۔

اپنے ہیلی کاپٹر کو پاکستانی سمجھ کر مار گرانے پر بھارتی فضائیہ کے افسر کیخلاف کارروائی

نئی دلی: بھارتی وزارت دفاع نے غلطی سے اپنے ہی Mi-17  ہیلی کاپٹر کو میزائل سے تباہ کرنے والے انڈین ایئر فورس کے آفیسر کے خلاف فوجداری قوانین کے تحت کارروائی کا فیصلہ کرلیا ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق بھارت نے 27 فروری کو سری نگر میں تباہ ہونے والے ہیلی کاپٹر کے ذمہ دار کیخلاف مجرمانہ غفلت برتنے پر محکمانہ تادیبی کارروائی کا فیصلہ کیا ہے، یہ کارروائی فوجداری قوانین کے تحت کی جائے گی۔ اس سلسلے میں ممکنہ آئینی اقدامات اور قوانین پر غور کیا جا رہا ہے۔

کورٹ آف انکوائری کی انویسٹی گیشن کی ابتدائی رپورٹ میں انکشاف کیا گیا تھا کہ سری نگر میں تباہ ہونے والا Mi-17   ہیلی کاپٹر غلطی سے انڈین ایئر فورس کے زمین سے فضا میں مار کرنے والے میزائل کی زد میں آگیا تھا جس پر  ایئر آفیسر کمانڈنگ سری نگر ایئر بیس کو عہدے سے ہٹا دیا گیا تھا۔

اب جب کہ انکوائری مکمل ہونے والی ہے اور یہ واضح ہوچکا ہے کہ ہیلی کاپٹر کو دشمن طیارہ سمجھ کر غلطی سے نشانہ بنایا گیا ہے جس کے نتیجے میں ہیلی کاپٹر میں سوار پانچوں اہلکار ہلاک ہوگئے تھے۔ بھارتی وزارت دفاع نے غفلت برتنے والے انڈین ایئر فورس کے آفیسر کیخلاف تادیبی کارروائی کا فیصلہ کرلیا ہے۔

واضح رہے کہ 27 فروری کو پاک فضائیہ نے پاکستان کی فضائی حدود کی خلاف ورزی کرنے والے دو بھارتی طیاروں کو مار گرایا تھا جب کہ ایک بھارتی پائلٹ ابھی نندن کو حراست میں لے لیا گیا تھا۔

نیوزی لینڈ میں مساجد پر حملہ کرنے والے ملزم پر دہشت گردی کی دفعات عائد

کرائسٹ چرچ: نیوزی لینڈ میں نماز جمعہ کے وقت دو مساجد پر حملہ کرکے 51 نمازیوں کو شہید کرنے والے ملزم برینٹن ٹیرینٹ پر دہشت گردی ایکٹ کے تحت دفعات عائد کردی گئی ہیں۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق کرائسٹ چرچ مساجد پر حملہ کر کے 51 نمازیوں کو شہید اور 40 سے زائد کو زخمی کرنے والے سفید فام انتہا پسند آسٹریلوی شہری برینٹن ٹیرینٹ پر دہشت گردی ایکٹ کے تحت دفعات عائد کردی گئی ہیں۔ نیوزی لینڈ میں پہلی مرتبہ کسی ملزم پر دہشت گردی ایکٹ کے تحت مقدمہ چلے گا۔

نیوزی لینڈ پولیس نے مساجد حملے میں شہید ہونے والے افراد کے لواحقین کے سامنے اس بات کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ برینٹن ٹیرینٹ پر دہشت گردی ایکٹ کے تحت مقدمے کی سماعت اب گزشتہ ماہ جون میں ہوگئی اور یہ سماعت دہشت گردی ایکٹ کے تحت ہوگی جب کہ ملزم کو 50 قتل اور 40 اقدام قتل کے مقدمات کا سامنا بھی ہوگا۔

پولیس نے لواحقین کو اب تک کی تحقیقات سے متعلق اعتماد میں بھی لیا اور خودکار اسلحے کی فروخت کے حوالے سے آئینی ترمیم کے بارے میں بتایا۔ لواحقین اور ورثاء کے لیے نرم کی گئی ویزہ پالیسی کا بھی تذکرہ کیا جب کہ لواحقین نے اب تک کی کارروائی پر اطمینان کا اظہار کیا۔

واضح رہے کہ 28 سالہ آسٹریلوی شہری برینٹن ٹیرینٹ نے 15 مارچ کو کرائسٹ چرچ کی دو مساجد میں گھس کر خود کار اسلحے سے اندھا دھند فائرنگ کی تھی اور حملے کی کارروائی کو اپنے فیس بک اکاؤنٹ پر براہ راست نشر کیا تھا۔

جنگ ہوئی تو ایران ختم ہوجائے گا، ٹرمپ کی دھمکی

 واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایران کو خبردار کیا ہے کہ اگر دونوں ممالک کے درمیان جنگ ہوئی تو ایران تباہ ہوجائے گا۔

امریکی صدر نے ٹوئٹ کرتے ہوئے کہا کہ اگر ایران جنگ چاہتا ہے تو اس صورت میں ایران کا باقاعدہ طور پر خاتمہ ہوجائے گا، لہذا ایران امریکا کو دوبارہ دھمکی دینے کی غلطی نہ کرے۔

امریکا اور ایران کے درمیان کشیدگی عروج پر ہے، اور امریکا نے رواں ماہ خلیج فارس میں مزید جنگی بحری جہاز اور طیارے بھی تعینات کردیے ہیں۔

صدر ٹرمپ کا یہ بیان ان کے رویے میں تبدیلی کی عکاسی کرتا ہے کیونکہ چند روز قبل ہی انہوں نے کہا تھا کہ وہ نہیں چاہتے کہ ایران کے ساتھ کشیدگی جنگ کی صورت اختیار کرجائے۔ صحافیوں سے گفتگو کے دوران انہوں نے یہ بھی کہا کہ وہ پرامید ہیں کہ امریکہ اور ایران کی جنگ نہیں ہوگی۔

دوسری جانب ایران نے بھی جنگ کے امکانات کو رد کیا تھا اور ایرانی وزیرِ خارجہ جواد ظریف نے کہا تھا کہ ایران جنگ کا خواہشمند نہیں ہے اور میرے خیال میں ڈونلڈ ٹرمپ بھی ایران سے جنگ نہیں کرنا چاہتے۔

امریکا میں سی آئی اے افسر کو چین کیلیے جاسوسی پر 20 سال قید

ورجینیا: امریکا میں سی آئی اے افسر کیون میلوری کو چین کے لیے جاسوسی کرنے کے الزام میں 20 سال قید کی سزا سنادی گئی ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکا کی مقامی عدالت نے ایک خفیہ سماعت کے دوران سی آئی اے کے سابق افسر کیون میلوری پر چین کے لیے جاسوسی کرنے کا الزام ثابت ہونے پر 20 سال قید کی سزا سنادی ہے۔

کیون میلوری کو 2017 میں شکاگو ایئرپورٹ پر شنگھائی سے واپسی پر اُس وقت حراست میں لے لیا گیا تھا جب ان کے سامان سے چھپائے گئے 13 ہزار پاؤنڈ برآمد ہوئے تھے۔  سی آئی افسر کیون نے تفتیشی اہلکاروں سے مکمل تعاون کیا تھا۔

کیون کے سامان میں ایک ’محفوظ موبائل‘ بھی برآمد ہوا تھا جسے کوئی اور استعمال نہیں کرسکتا تھا اور جو انہیں چین کے اہلکار نے دیا تھا، اس موبائل میں ایک میسیج پڑھا گیا جس میں درج تھا کہ ’ تمہارا مقصد اطلاعات کی فراہمی ہے اور ہمارا کام اس کے عوض ادائیگی کرنا ہے۔‘

عدالت نے اپنے فیصلے میں لکھا کہ کیون میلوری نے تھوڑے پیسوں کے لیے سب سے اہم چیز ’اعتبار‘ بیچ دی، ملک کے اہم راز کو افشا کرنا ناقابل معافی جرم ہے جس کے لیے 20 سال قید کی سزا بہت کم ہے لیکن قانون کی حدود یہیں تک ہے۔

تاجکستان کی جیل میں داعش قیدیوں کی ہنگامہ آرائی، 32 ہلاک

دوشنبے: تاجکستان کی حساس جیل میں خطرناک داعش قیدیوں کی ہنگامہ آرائی میں 3 سیکیورٹی گارڈ اور 29 جنگجو ہلاک ہوگئے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق تاجکستان کی جیل میں اسیر داعش قیدیوں کے 2  گروہوں کے درمیان جھگڑا ہوا، ایک گروہ نے 3 سیکیورٹی گارڈ کو چھریوں کے وار کر کے ہلاک کیا اور سرکاری اسلحہ چھین کر مخالف قیدی گروہ پر فائرنگ کرکے 5 کو ہلاک کردیا۔

سیکیورٹی گارڈ کی ہلاکت کے بعد جیل میں مزید نفری طلب کی گئی، سیکیورٹی فورسز نے آپریشن کے دوران 24 قیدیوں کو ہلاک کردیا جس کے بعد جیل میں صورت حال پر قابو پالیا گیا۔ اس جیل میں 1500 قیدی اسیر ہیں جن میں اکثریت خطرناک داعش جنگجوؤں کی ہے۔

حکومتی ترجمان کا کہنا ہے کہ جیل میں جھگڑا داعش کمانڈر بیخروز گلمورود کے گروہ نے شروع کیا، بیخروز گلمورود تاجک اسپیشل فورس کے کرنل گلمورود خالیموف کے بیٹے ہیں جنہوں نے 2015 میں داعش میں شمولیت اختیار کی تھی اور شام میں لڑائی کے دوران مارے گئے تھے۔

واضح رہے کہ گزشتہ برس بھی داعش قیدیوں نے جیل میں ہنگامہ آرائی کرکے درجنوں کو ہلاک کر دیا تھا، تاجکستان حکومت نے شدت پسند مسلح تنظیموں سے علیحدگی اختیار کرنے والے جنگجوؤں کے لیے عام معافی کا اعلان کیا ہے۔

برازیل کے نائٹ کلب میں فائرنگ سے 11 افراد ہلاک

برازیلیا: برازیل کے نائٹ کلب میں مسلح افراد نے اندھا دھند فائرنگ کرکے 11 افراد کو قتل کردیا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق تین کاروں اور دو موٹر سائیکل سوار 7 مسلح حملہ آوروں نے نائٹ کلب پر دھاوا بول دیا، اندھا دھند فائرنگ کی زد میں آکر 11 افراد ہلاک ہوگئے، ہلاک ہونے والوں میں 6 خواتین اور 5 مرد شامل ہیں۔

ریسکیو ادارے نے ہلاک اور زخمی ہونے والوں کو قریبی اسپتال منتقل کیا جہاں 15 زخمیوں کو طبی امداد فراہم کی جارہی ہے، دو زخمیوں کی حالت نازک ہونے کے باعث ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ یہ علاقہ جرائم پیشہ افراد کی آماج گاہ ہے اور فائرنگ کا واقعہ بھی دو گروہ کے درمیان تنازع لگتا ہے تاہم ابھی تحقیقات جاری ہیں۔ لاشوں کی شناخت کے بعد حقائق سامنے آنے کی امید ہے۔

ایران کی دھمکیوں پر خلیجی ممالک اور عرب لیگ کا ہنگامی اجلاس طلب

ریاض: سعودی عرب نے ایران تنازع اور آبنائے ہرمز میں تناؤ کے باعث خلیجی ممالک اور عرب لیگ کا ہنگامی اجلاس 30 مئی کو مکہ میں طلب کرلیا ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق سعودی عرب نے، ایران کی دھمکیوں،اپنے تیل بردار بحری جہازوں پر حملے اور خلیج عمان میں پیدا ہونے والے تناؤ کے پیش نظر خلیجی ممالک اور عرب لیگ میں شامل ممالک کا ہنگامی اجلاس طلب کرلیا ہے۔

سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان عرب لیگ میں شامل ممالک اور خلیجی ممالک کے سربراہان کو 30 مئی کو مکہ آنے کی دعوت دی ہے،  جہاں ہنگامی اجلاس میں خلیج عمان میں جاری تناؤ کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا جائے گا اور ایران کی دھمکیوں پر مشترکہ لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔

دوسری جانب سعودی  کے اخبار الشرق الاوسط میں شائع ہونے والی رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ سعودی عرب اور خلیجی ممالک نے امریکی افواج کی خلیج میں تعیناتی کی منظوری دے دی ہے تاہم اس سے قبل ہی امریکا قطر میں اپنے فوجی کیمپ میں 10 سے زائد جدید فائٹر طیارے اور ایک طیارے بردار بحری بیڑا بھیج چکا ہے

Google Analytics Alternative