بین الاقوامی

فرانس میں پُرتشدد مظاہروں کے بعد پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ معطل

پیرس: فرانس میں پُر تشدد مظاہروں نے حکومت کو پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کو معطل کرنے پر مجبور کر دیا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق فرانس کے وزیراعظم ایڈوارڈ فلپس نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کو 6 ماہ کے لیے معطل کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ مظاہرین کو قائل کیے بغیر کسی قسم کا ٹیکس عائد نہیں کیا جائے گا۔

فرانسیسی صدر میکرون کی ہدایت پر وزیراعظم فلپس نے بیرون ملک دورہ منسوخ کر کے مظاہرین کے رہنماؤں بینجمن کووچی اور جیکولین موریو سے ملاقات کی اور کامیاب مذاکرات کے بعد پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کو معطل کردیا۔

فرانس میں اُس وقت ہنگامے پھوٹ پڑے تھے جب فرانس کے صدر ایمانیول میکرون نے گیسولین اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافے کا اعلان کیا تھا، ان قیمتوں کا اطلاق یکم جنوری سے ہونا تھا، فرانس میں زیادہ تر ڈیزل استعمال ہوتا ہے۔

ڈیزل کی قیمتوں میں اضافے کے اعلان سے عوامی احتجاج نے پُر تشدد مظاہروں کی شکل اختیار کرلی، پیرس کی سڑکیں میدان جنگ بن گئیں، دو ہفتے سے جاری ہنگامہ آرائی میں 3 افراد ہلاک اور 400  سے زائد زخمی ہوگئے تھے۔

مشتعل مظاہرین نے درجنوں گاڑیوں کو نذر آتش کیا اور سرکاری املاک کو شدید نقصان پہنچایا جب کہ چند مظاہرین نے پارلیمنٹ میں بھی داخل ہونے کی کوشش کی۔ جس پر 500 سے زائد مظاہرین کو حراست میں لے لیا گیا تھا۔

کانگریس کی وجہ سے کرتارپور پاکستان کا حصہ ہے، مودی کی ہرزہ سرائی

جودھ پور: بھارتی وزیراعظم نریندرا مودی نے کہا ہے کہ تقسیم ہند کے وقت کانگریس قیادت کی کوتاہی کی وجہ سے کرتار پور صاحب پاکستان میں چلا گیا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق پاکستان کی جانب سے کرتار پور راہداری کھولنے اور سکھ برادری کا اعتماد حاصل کرنے پر بوکھلاہٹ کے شکار وزیراعظم نریندرا مودی نے اپنی ہرزہ سرائی سے کانگریس کی قیادت اور بھارت کے بانی کہلائے جانے والے گاندھی جی کو بھی نہیں بخشا۔

وزیراعظم نریندرا مودی نے راجستھان میں انتخابی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تقسیم ہند کے وقت کانگریس کی قیادت نے کرتار پور کی مذہبی اہمیت اور سکھ برادری کے جذبات کی جانب توجہ نہیں دی جس کی وجہ سے مقدس مقام سرحد کے اُس پار رہ گیا۔

تاریخ سے نابلد نریندرا مودی کا مزید کہنا تھا کہ بعد میں آنے والی کانگریس حکومتوں نے بھی 70 برسوں میں کرتار پور تک بھارت کی رسائی کے لیے کچھ نہیں کیا، کانگریس کی اس غلطی کو اب میں درست کروں گا۔ اگر آج کرتار پور راہداری کھل گئی ہے تو یہ بی جے پی کو ملنے والی عوامی حمایت کا نتیجہ ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ ہفتے پاکستان نے سکھ یاتریوں کے لیے اُن کے مقدس مقام تک بغیر ویزے کے جانے کے لیے کرتار پور بارڈر کھول دیا۔ افتتاحی تقریب میں بھارت سے کرکٹر اور وزیر نجوت سنگھ سدھو نے بھی شرکت کی تھی۔

خاشقجی قتل؛ امریکی سینیٹ اراکین کو آج بریفنگ دی جائے گی، سی آئی اے

 واشنگٹن: سی آئی اے کی ڈائریکٹر جینا ہیسپل سعودی صحافی جمال خاشقجی کے قتل کے حوالے سے امریکی سینیٹ کے اراکین کو اہم بریفنگ دیں گی۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی تفتیشی ادارے سی آئی اے کی ڈائریکٹر جینا ہیسپل صحافی جمال خاشقجی کی استنبول کے سعودی قونصل خانے میں بہیمانہ قتل سے متعلق تحقیقاتی رپورٹ پر آج سینیٹ اراکین کے ایک گروپ کو بریفنگ دیں گی۔

سی آئی اے کی جانب سے سینیٹ اراکین کو قتل سے متعلق حاصل ہونے والے شواہد پر بریفنگ دینے کا فیصلہ سینیٹ میں اپوزیشن اراکین کے مطالبے پر کیا گیا، سینیٹ اراکین نے صحافی کے قتل پر امریکی صدر کے بدلتے موقف پر شدید احتجاج کیا تھا اور قتل پر سی آئی اے کی بریفنگ کا مطالبہ کیا تھا۔

اس سے قبل امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو اور وزیر دفاع جیمز میٹس نے بھی سینیٹ کے اراکین کو صحافی کے قتل کی تفتیشی رپورٹ پر بریفنگ دی تھی تاہم سینیٹ میں موجود دونوں جماعتوں ریپبلکنز اور ڈیموکریٹس کے اراکین سی آئی اے کی ڈائریکٹر کی براہ راست بریفنگ کے مطالبے پر قائم رہے تھے۔

واضح رہے کہ سی آئی اے کی ایک ٹیم نے رواں برس اکتوبر میں استنبول کے سعودی قونصل خانے میں صحافی جمال خاشقجی کے بیدردی سے قتل کی تفتیش کرکے اپنی رپورٹ صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو پیش کی تھی جس میں  قتل کی منصوبہ بندی میں سعودی عرب کی اہم ترین شخصیت کے ملوث ہونے کا اشارہ کیا گیا ہے۔

کانگو میں حکومتی فورسز اور باغیوں میں لڑائی کے دوران 18 افراد ہلاک

کنشاسا: افریقی ملک کانگو میں باغیوں اور حکومتی فورسز کے درمیان جھڑپ میں 14 جنگجو اور 4 فوجی اہلکار ہلاک ہوگئے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق کانگو کے جنوبی علاقے میں فوج اور باغی جنگجوؤں کے درمیان گھمسان کی جنگ ہوئی، باغی جنگجو معدنیات سے بھرے علاقے کا کنٹرول حاصل کرنا چاہتے تھے جسے فوج نے ناکام بنا دیا۔

کانگو کے اس علاقے میں صدر کابیلا کے مخالف سابق کانگو آرمی جنرل ولیم اموری یکتومبا اپنے وفاداروں کے ہمراہ باغیوں کے گروپ میں ضم ہوگئے اور بروندی پر قبضہ کیا، جہاں اقوام متحدہ کی فورسز نے باغیوں کو پیچھے کو دھکیلا۔

کانگو میں لمبے عرصے سے صدارت کے عہدے پر براجمان صدر جوزف کابیلا کی تبدیلی کے لیے بالآخر 23 دسمبر کو انتخابات ہونے جا رہے ہیں تاہم اس سے قبل ہی امن عامہ کی صورت حال مزید مخدوش ہوگئی ہے۔

لسانی فسادات سے گھرے کانگو میں بیلجیئم سے 1960 میں آزادی کے بعد سے اب تک کبھی بھی انتقالِ اقتدار  پُرامن طریقے سے  مکمل نہیں ہو پایا ہے، موجود صدر بھی 2001 سے اپنے عہدے پر براجمان ہیں۔

واضح رہے کانگو میں لسانی فسادات اور بغاوت کے باعث معاشی صورت حال نہایت خراب ہے اور معدنیات سے مالامال علاقوں میں قبضے کے لیے حکومت اور باغیوں کے درمیان جھڑپیں معمول کی بات ہیں۔

افغان طالبان کے سینیئر کمانڈر ملا عبدالمنان امریکی فضائی حملے میں ہلاک

کابل: افغانستان میں امریکی فضائی حملے کے نتیجے میں طالبان کے سینیئر کمانڈر ملا عبدالمنان اخوند ہلاک ہو گئے ہیں۔

غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق ہفتے اور اتوار کی درمیانی رات افغان صوبے ہلمند کے ضلع نوزاد میں امریکی طیاروں نے افغان طالبان کے مشتبہ ٹھکانے پر حملہ کیا۔ جس میں 29  طالبان ہلاک اور کئی زخمی ہوئے۔ ہلاک ہونے والوں میں طالبان کی جانب سے ہلمند کے لئے مقرر کئے گئے گورنر اور عسکری سربراہ ملا عبدالمنان اخوند بھی شامل ہیں۔

افغان طالبان نے ملا منان کی موت کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ افغانستان سے غیر ملکی افواج کے انخلا تک اپنی جدو جہد جاری رکھیں گے۔

دوسری جانب افغان وزارتِ خارجہ کے ترجمان نجیب دانش نے کہا ہے کہ ملا منان کی موت طالبان کے لیے بہت بڑا دھچکہ ہے۔

واضح رہے کہ صوبہ ہلمند کو افغان طالبان کے سب سے بڑے گڑھ کے طور پر جانا جاتا ہے۔ 2014 میں برطانوی فوج کے انخلا کے بعد سے صوبے کے بیشتر حصے پر افغان طالبان کا تسلط ہے۔

قطر کا تیل پیدا کرنے والی 15 ممالک کی تنظیم ‘اوپیک’ سے نکلنے کا اعلان

دوحا: قطر نے تیل برآمد کرنے والے 15 ممالک کی تنظیم آرگنائزیشن آف پیٹرولیم ایکسپورٹنگ کنٹریز(اوپیک) سے نکلنے کا اعلان کردیا۔

قطری وزیر توانائی سعد شیردا الکابی نے پریس کانفرنس کے دوران اعلان کیا کہ اوپیک تنظیم کی رکنیت سے دستبرداری کا فیصلہ اس بات کا عکاس ہے کہ قطر نیچرل گیس کی پیداوار پر توجہ مرکوز کرنا چاہتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ قطر کی خواہش ہے کہ آنے والے دنوں میں نیچرل گیس کی پروڈکشن 77 ملین ٹن سے بڑھا کر 110 ملین ٹن کی جائے۔

قطری پیٹرولیم کی جانب سے آفیشل ٹوئٹر اکاؤنٹ سے جاری بیان میں بھی کہا گیا کہ قطر کی اوپیک تنظیم سے نکلنے کا اطلاق باضابطہ طور پر یکم جنوری 2019 سے ہوگا۔

Qatar Petroleum

@qatarpetroleum

دولة قطر تعلن انسحابها من عضوية منظمة الدول المصدرة للبترول “أوبك” اعتباراً من الأول من يناير 2019.

Qatar Petroleum

@qatarpetroleum

Qatar announces it was withdrawing from the Organization of Petroleum Exporting Countries “OPEC” effective 1 January 2019.

392 people are talking about this

قطر کی جانب سے اوپیک تنظیم سے باہر نکلنے کا اعلان اس موقع پر کیا گیا کہ جب تنظیم کا سالانہ اجلاس 6 دسمبر کو ہونے جارہا ہے۔

قطر پہلا خلیجی ملک ہے جس نے اوپیک سے نکلنے کا اعلان کیا، قطر نے 1961 میں اس تنظیم کے قیام کے ایک سال بعد اس میں شمولیت اختیار کی تھی۔

یاد رہے کہ سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، مصر اور بحرین نے قطر پر دہشتگردوں کی مالی معاونت کا الزام عائد کرتے ہوئے دوحا سے تعلقات منقطع کرلیے تھے۔

فرانسیسی صدر کی وزیراعظم کو مشتعل مظاہرین سے مذاکرات کی ہدایت

پیرس: فرانس میں تیل کی قیمتوں میں اضافے کے خلاف بدترین پُرتشدد مظاہروں نے صدر ایمانوئیل میکرون کو مذاکرات پر مجبور کردیا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق فرانس کے صدر ایمانوئیل میکرون نے وزیراعظم کو مظاہرین سے مذاکرات کی ہدایت کی ہے۔ وزیراعظم اپنی کابینہ کے اہم وزرا کے ہمراہ مظاہرین کے ایک گروپ سے ملاقات کریں گے۔

France 2

فرانس میں تیل کی قیمتوں میں اضافے کے خلاف ہنگامے پھوٹ پڑے ہیں، دو ہفتے سے جاری مظاہروں میں 3 شہری ہلاک اور 100 سے زائد شہری زخمی ہوگئے جب کہ درجنوں گاڑیوں کو نذر آتش کردیا گیا، مظاہرین نے پارلیمنٹ میں بھی داخل ہونے کی کوشش کی۔

France 5

فرانس کے صدر میکرون کو اپنے 18 ماہ کے دور صدارت میں پہلی بار اتنی سخت عوامی مزاحمت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ مظاہرین کا مطالبہ ہے کہ صدر اپنی مصروفیات ترک کر کے سامنے آئیں اور تیل کی قیمتوں میں اضافے پر وضاحت دیں۔

France 3

دوسری جانب پولیس نے 378 مظاہرین کو حراست میں لے رکھا ہے جن میں 18 سال سے کم عمر 33 بچے بھی شامل ہیں۔ ان افراد کو پولیس سے جھڑپوں کے دوران گرفتار کیا گیا تھا۔ مظاہرین زیرِ حراست تمام افراد کی رہائی کا مطالبہ بھی کر رہے ہیں۔

France 4

ان مظاہروں کی سب سے خاص بات مظاہرین کا ریسکیو اہل کاروں کی طرح پیلے رنگ کی جیکٹ زیب تن کرنا ہے۔ تمام مظاہرین اسی جیکٹ کو پہنے نظر آتے ہیں اس لیے ریسکیو اہلکاروں کو بھی مشکلات کا سامنا رہتا ہے۔

France 6

مظاہرین نے بڑے پیمانے پر سرکاری املاک کو نقصان پہنچایا اور پیرس کے مشہور ’آرک ڈی ٹریومف‘ میں نصب مجسموں کو بھی توڑ پھوڑ کا نشانہ بنایا۔

پاکستانی وزیر خارجہ کے گگلی والے بیان نے انہیں بے نقاب کر دیا، سشما سوراج

نئی دلی: بھارتی وزیرخارجہ سشما سوراج کا کہنا ہے کہ پاکستانی وزیر خارجہ کے گگلی والے بیان نے انہیں بے نقاب کر دیا۔  

سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ہرزہ سرائی کرتے ہوئے بھارتی وزیرخارجہ سشما سوراج نے کہا کہ پاکستانی وزیرخارجہ کے گگلی والی بیان سے کسی کا کچھ نہیں گیا، بلکہ وہ خود ہی بے نقاب ہوئے، ان کا بیان ظاہر کرتا ہے کہ آپ سکھ برادری کے جذبات کا احترام نہیں کرتے بلکہ آپ صرف گگلیاں کھیلتے ہیں۔

سشما سوراج نے کہا کہ میں واضح کرنا چاہتی ہوں کہ ہم آپ کی گلگی کے جال میں نہیں پھنسے جب کہ دو بھارتی وزیر کرتارپور کے گردوارے میں حاضری کیلئے آئے تھے۔

واضح رہے کہ وزیر خارجہ شاہ محمود نے گزشتہ روز کہا تھا کہ نیویارک میں پاک بھارت وزراء خارجہ کی ملاقات ہوجاتی تو اچھا تھا لیکن سشما سوراج اندرونی سیاسی مجبوری کی وجہ سے ملنے سے انکاری ہیں جب کہ عمران خان نے کرتارپور کی گگلی پھینکی تو بھارت کو اپنے وزیر بھیجنے پڑے۔

Google Analytics Alternative