بین الاقوامی

عراقی فوج اور داعش کے درمیان فلوجہ میں جنگ جاری

نیو یارک  اقوام متحدہ کا کہنا ہے کہ عراقی فوج اور داعش کے درمیان فلوجہ میں جاری جنگ میں 400سے زائد خاندانوں کی زندگیاں داؤ پر لگی ہوئی ہیں ۔ عراقی فوج اور اسکی اتحادی ملیشیاؤں کے گھیرے میں پھنسی شدت پسند تنظیم داعش شہریوں انسانی ڈھال کے طو رپر استعمال کررہی ہے۔
ذرائع  کے مطابق عراق کیلئے اقوام متحدہ کی مندوب لیزے گرانڈے نے نیویارک میں گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ داعش ان خاندانوں کو فلوجہ کے مرکزی علاقے میں منتقل کر رہی ہے، جہاں سے انہیں کہیں اور جانے کی اجازت نہیں دی جا رہی۔ گرانڈے نے کہا کہ متاثرین کو شدید خطرہ لاحق ہے۔ خیال رہے کہ عراق کی فوج نے پیر کے روز تین اطراف سے داعش کے زیرِ قبضہ شہر فلوجہ جسے وہ اپنی خود ساختہ خلافت کا ’دارالخلافہ‘قراردیتی ہے میں داخل ہونے کی کوشش کا آغاز کیا تھا۔ بغداد سے پچاس کلومیٹر مغرب کی جانب واقع اس شہر میں تقریباً پچاس ہزار شہری پھنسے ہوئے ہیں۔ان پھنسے ہوئے شہریوں کو خوراک اور دیگر بنیادی ضروریات کی شدید قلت ہے ۔جبکہ ایسی بھی اطلاعات ہیں کہ وہاں لوگ بھوک سے مر رہے ہیں۔

ترکی کی شام میں بمباری: داعش کے14عسکریت پسند ہلاک

انقرہ  ترک فوج نے شامی شہر حلب کے نزدیک دہشت گرد ملیشیا داعش کے ٹھکانوں پر بمباری کرتے ہوئے 14 عسکریت پسندوں کو ہلاک کر دیا ہے۔
قبل ازیں گزشتہ روز ایران کا بھی حلب میں جاری جنگ میں شامل رہنے سے متعلق بیان سامنے آیا تھا۔ایرانی وزیردفاع کا کہنا تھا کہ وہ حلب کی دہشتگردوں سے آزادی تک شام میں اپنے عسکری مشیران کو بھیجتا رہے گا۔ان کا کہنا تھا کہ جہاں تک ہو سکا شامی بھائیوں کی مدد کریں گے۔
دریں سعودی عرب نے شام میں اپوزیشن کی حامی ملیشیاو¿ں کو اسلحہ کی فراہمی جاری رکھنے کا اعلان کیا تھا۔اس حوالے سے سعودی وشزیر خارجہ عادل الجبیر نے گزشتہ روز ایک اجلاس میں کہا تھا کہ سعودی عرب شام میں اپوزیشن جماعتوں کے حامی جنگجوو¿ں کو اسلحہ کی فراہمی کا حامی ہے اور سعودی حکومت شامی اپوزیشن کی مدد جاری رکھے گی۔

بڑے سیکولر ملک نے نظام شریعت نافذ کرنے کا فیصلہ کر لیا

کوالالمپور  ملائیشیا کا شمار اسلامی دنیا کے جدید ترین ممالک میں ہوتا ہے، اور اس کے بڑے شہر تو بالکل مغربی دنیا کا نظارہ پیش کرتے ہیں۔ شاید یہی وجہ ہے کہ جب اس ملک میں شریعت کے نفاذ کا اعلان سامنے آیا تو نہ صرف مغرب میں تشویش کا اظہار شروع ہو گیا بلکہ ملک کے اندر بھی اس فیصلے کی شدید مخالفت شروع ہو گئی ہے۔
ذرائع  کے مطابق شرعی قوانین کے نفاذ کے لئے نیا بل وزیراعظم نجیب رزاق کی مخلوط حکومت کی طرف سے پیش کر دیا گیا ہے۔ ابتدائی طور پر یہ بل اسلامی پارٹی ملائیشیاءکی طرف سے تجویز کیا گیا تھا۔ ملک میں عنقریب دو اہم ضمنی انتخابات بھی ہونے والے ہیں اور ناقدین کا کہنا ہے کہ وزیراعظم نجیب رزاق اسلامی سزاﺅں کے قانون کو محض ووٹرز کو متاثر کرنے اور خود پر جاری تنقید سے توجہ ہٹانے کے لئے استعمال کررہے ہیں۔
حزب مخالف کی کئی جماعتیں سر قلم کرنے اور ہاتھ کاٹنے جیسی سزاﺅں کے نفاذ کی اجازت دینے پر کسی طور تیار نظر نہیں آتیں۔ مخلوط حکومت میں شامل ملائیشین چائنیز ایسوسی ایشن پارٹی نے بل کو غیر آئینی قرار دے دیا ہے۔ اس پارٹی کا مﺅقف ہے کہ حدود قوانین ملائیشیا کے وفاقی آئین کی روح کے خلاف ہیں اور ملک میں بسنے والے مختلف طبقات کے درمیان کشیدگی کا باعث بنیں گے۔
واضح رہے کہ وزیراعظم نجیب رزاق پر 68 کروڑ ڈالر (68ارب پاکستانی روپے) کی کرپشن کے الزامات ہیں، تا ہم انہوں نے اپنی صفائی پیش کرنے کی بجائے شرعی قوانین کا بل متعارف کروا دیا ہے، اور یہی وجہ ہے کہ لوگ ان کی نیت پر شک کر رہے ہیں۔

شمالی کوریا کا چوتھا میزائل تجربہ ناکام ہو گیا، جنوبی کوریا

سیﺅل جنوبی کوریا کا کہنا ہے کہ شمالی کوریا کا میزائل تجربہ ناکام ہو گیا ہے۔جنوبی کوریا کے جوائنٹ چیفس آف سٹاف (جے سی ایس)کا کہنا ہے کہ شمالی کوریاکے مشرقی شہر ونسان میں پیونگ یانگ حکومت کی جانب سے مقامی وقت کے مطابق صبح5 بجکر 20منٹ پر بیلسٹک میزائل کا تجربہ کیا گیا جو کہ ناکام رہا۔
ذرائع  کے مطابق اس حوالہ سے جے سی ایس کے پبلک افیئرز کے سربراہ جیون ہاگیو کا کہنا ہے کہ ہم اپنی طرف سے ممکنہ طور پر کسی بھی اقدام کے لئے تیار تھے۔تاہم مزید تفصیلات فراہم نہیں کی گئیں۔
دوسری جانب جنوبی کوریا کے خبر رساں ادارے یونہاپ کے مطابق چوتھا ناکام ہونے والا تجربہ بھی مسندن میزائل کا تھا۔ذرائع کے مطابق پابندیوں اور عالمی تحفظات کے باوجودیہ شمالی کوریا کی جانب سے میزائل تجربے کی تازہ ترین کوشش ہے جبکہ پابندیوں کی زیادہ ذمہ داری شمالی کوریا کے اتحادی چین پر پڑ رہی ہے۔

ناگپور کے فوجی اسلحہ ڈپو میں آگ بھڑک اٹھی 20 فوجی ہلاک اور 19 زخمی

نئی دہلی ناگپور کے فوجی اسلحہ ڈپو میں آگ بھڑک اٹھی جس کی زد میں آکر دو افسروں سمیت 20فوجی ہلاک اور 19زخمی ہو گئے ۔
بھارتی میڈیا کے مطابق ریاست مہاراشٹر کے شہر ناگپور کے فوجی اسلحہ کے ڈپو میں اچانک الگ لگ گئی جس کے نتیجے میں 20فوجی ہلاک ہو گئے ۔ناگپور ڈپو کئی ایکڑ پر محیط ہے جوبھارت میں فوجی اسلحہ کا سب سے بڑا جبکہ ایشیا میں دوسرا بڑا ڈپو ہے ۔

آگ گزشتہ رات ڈپو میں دھماکہ ہونے کے باعث لگی ا ور دیکھتے ہی دیکھتے پوری عمارت کو اپنی لپیٹ میں لے لیا جس کے بعد آگ پر قابو پانے کیلئے امدادی سرگرمیاں جاری تھیں او ر ڈپو کے قریب رہائش پزیر کم و بیش 1ہزار شہریوں کو فوری طور پر محفوظ مقامات پر منتقل کر دیا گیا تھا ۔
وزیر دفاع منوہر پرکار آج ممکنہ طور پر جائے حادثہ کا دورہ بھی کریں گے ۔

بھارت: کم عمر لڑکی کے گینگ ریپ اور قتل میں ملوث مبینہ دو ملزمان گرفتار

کھنؤ: ہندوستانی پولیس نے کم عمر لڑکی کے گینگ ریپ اور قتل میں ملوث مبینہ دو ملزمان کو گرفتار کرلیا ہے۔ذرائع  کے مطابق ہندوستان کی شمالی ریاست اُتر پردیش میں گذشتہ ہفتے ہندوؤں کی نچلی ذات سے تعلق رکھنے والی 15 سالہ لڑکی کو مبینہ طور پر 3 افراد نے اس کے گاؤں کے باہر گلادبا کر قتل کردیا تھا۔

سپریٹنڈنٹ پولیس (ایس پی) سالک رام ورما کا کہنا تھا کہ لڑکی کی لاش دوسرے روز ضلع بہرائچ میں اس کے گھر سے کچھ دور ایک درخت کے ساتھ لٹکی ہوئی ملی تھی۔

ان کا کہنا تھا کہ واقعے میں ملوث دو افراد کو گرفتار کرلیا گیا ہے، تاہم تیسرا شخص فرار ہوگیا۔

لڑکی نے مبینہ طور پر ایک شخص سے ملاقات کیلئے رات کو اپنے گھروالوں کو بغیر بتائے گئی تھی تاہم ملاقات کے وقت اس پر دو دیگر افراد نے حملہ کردیا۔

پولیس عہدیدار کا کہنا تھا کہ ‘جب لڑکی نے کچھ مزاہمت کی تو اسے ریپ کا نشانہ بنانے کے بعد گلا دبا کر قتل کردیا گیا، اور واقعے کو خودکشی کا رنگ دینے کیلئے انھوں نے لڑکی کی لاش کو درخت سے لٹکایا اور وہاں سے فرار ہوگئے۔

سالک رام ورما کا کہنا تھا کہ ‘میں نے 4 پولیس اہلکاروں کو غفلت کا مظاہرہ کرنے پر معطل کردیا ہے اور ساتھ ہی متعلقہ انسپکٹر کو ہدایات جاری کیں ہیں کہ تیسرے ملزم کو جلد از جلد گرفتار کیا جائے۔

انھوں نے بتایا کہ میڈیکل رپورٹ میں لڑکی کے ساتھ ریپ اور گلا دبا کر ہلاک کرنے کی تصدیق ہوئی ہے۔

یاد رہے کہ دو سال قبل بھی ہندوستان کی شمالی ریاست اتر پردیش کے ایک گاؤں میں دو لڑکیوں کی لاشیں درخت سے لٹکی ہوئی ملی تھی، ان کے رشتہ داروں کا دعویٰ تھا کہ لڑکیوں کو گینگ ریپ کا نشانہ بنانے کے بعد ان کی لاشوں کو جلا دیا گیا تھا

تاہم سرکاری تحقیقاتی رپورٹ میں واقعے کو خود کشی قرار دیتے ہوئے کہا گیا تھا کہ ان کے ساتھ ریپ نہیں ہوا اور نہ ہی انھیں قتل کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ گذشتہ کچھ سالوں میں ہندوستان میں خواتین کے ساتھ زیادتی کے واقعات میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے، تاہم 2012 میں دہلی میں بس میں ایک طالبہ کے ساتھ گینگ ریپ کے واقعے کے بعد ملک بھر میں احتجاجی مظاہروں کا سلسلہ شروع ہوگیا تھا۔

مظاہرین نے ایسے واقعات میں ملوث ملزمان کو سخت سے سخت سزا دینے اور حکومت سے قانون سازی کا مطالبہ کیا تھا۔

امریکا سے قبل افغانستان کا دورہ کرونگا،نرندر مودی

نئی دہلی: ہندوستانی وزیراعظم نریندر مودی دورہ امریکا سے قبل رواں ہفتے افغانستان کا دورہ کریں گے۔

واضح رہے کہ نریندر مودی نے اگلے ماہ 8 جون کو امریکا میں کانگریس کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کرنا ہے۔ ذرائع کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ وزیراعظم مودی 4 جون کو پہلے افغانستان جائیں گے، جہاں وہ ہرات میں سلما ڈیم کا افتتاح کریں گے جس کے لیے فنڈز ہندستان نے فراہم کیے ہیں۔

این ڈی ٹی وی کے مطابق بعدازاں وزیراعظم مودی 5 جون کو قطر روانہ ہوں گے، جہاں وہ امیر قطر شیخ تمیم بن حماد التھانی سے تجارتی روابط، خصوصاً ہائیڈرو کاربن سیکٹر کے حوالے سے مذاکرات کریں گے۔

واشنگٹن میں امریکی صدر براک اوباما سے ملاقات سے قبل نریندر مودی 6 جون کو سوئٹزرلینڈ میں بھی رکیں گے، جہاں وہ سوئس حکام کے ساتھ بلیک منی کا معاملہ اٹھائیں گے۔

امریکا میں نریندر مودی 7 اور 8 جون کو دو طرفہ ملاقاتیں کریں گے، جبکہ 8 جون کو وہ امریکی کانگریس کے ایک مشترکہ اجلاس سے بھی خطاب کریں گے۔

کشتی ڈوبنے سے 700 افراد جاں بحق ہوگئے, کئی درجن بچے بھی شامل

بحیرہ روم میں تارکین وطن کی کشتی ڈوبنے سے 700 افراد جاں بحق ہوگئے،مرنے والوں میں کئی درجن بچے بھی شامل ہیں ۔ غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق اقوام متحدہ کے پناہ گزینوں کے ادارے یو این ایچ سی آر اور سیو دی چلڈرن نے کہا ہے کہ کشتی میں لگ بھگ 11 سو سے زائد افراد سوار تھے یہ کشتی لیبیا سے روانہ ہوئی تھی ،انہوں نے مزید بتایا کہ مرنے والوں شناخت تاحال نہیں ہو سکی ہے.

Google Analytics Alternative