بین الاقوامی

سعودی عرب کے حکومتی محکموں میں ملازمتیں خالی

ریاض : سعودی عرب حکومت کے محکموں میں 20فیصد کے زائد ملازمتیں خالی ہیں عرب میڈیا کے رپورٹس کے مطابق حکومت کے مختلف محکموں میں اس وقت 319,474 ملازمتیں خالی ہیں خالی ملازمتوں میں زیادہ تر صحت اور تعلیم کے محکموں میں سے ہیں خالی ملازمتوں میں گریڈ ایک سے لیکر اعلیٰ درجوں کی ہزاروں ملازمتیں ہیں ۔ عرب میڈیا کے مطابق سعودی محکمہ لیبر  ان ملازمتوں کو بھرنے کیلئے اقدامات اٹھا رہا ہے اور توقع ہے کہ دنیا کے مختلف ممالک کے ذریعے ملازمین کو بھرتی کیا جائے کیونکہ سعودی نوجوانوں کی اکثریت سرکاری ملازمت کو تر جیح نہیں دیتی ااور جو لوگ سرکاری ملازمین ہیں انکی کارکردگی غیر ملکی ملازمتوں کے مقابلے میں انتہائی کم ہے جس کیوجہ سے عیر ملکیوں کو اب پرائیوٹ سیکٹر کے بعد سرکاری ملازمتوں میں بھی ترجیح دی جائیگی دوسری جانب سعودی محکمہ لیبر کے سخت قوانین کیوجہ سے لاکھوں غیر ملکی بھی ملک چھوڑ کر واپس جاچکے ہیں جس کے بعد سعودی حکومت نے لیبر قوانین میں بھی بڑی اہم تبدیلیاں کی ہے اب اقامہ کی مدت بڑھا کر 5سال کردی گئی ہے جبکہ کفیلوں کے بارے میں بھی توقع کی جارہی ہے کہ آئندہ چند دنوں یا ہفتوں میں قانون میں اہم ترین تبدیلی کی جائیگی.

روس کا داعش کیخلاف اپنا خوفناک ترین ہتھیار استعمال کرنے کا فیصلہ

ماسکو : روس نے داعش کیخلاف اپنا ایک خوفناک ترین ہتھیار ٹیسٹ کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے جو دشمن کو عارضی طور پراندھا کرسکتا ہے۔ اس انکشاف نے داعش سے زیادہ امریکا کو پریشان کردیا ہے کیونکہ روس کے ساتھ اس کی مخاصمت کوئی ڈھکی چھپی بات نہیں۔برطانوی اخبار کے مطابق ’رے گن‘ کہلانے والی نئی قسم کی گن انتہائی طاقتور روشنی کی شعاعیں خارج کرتی ہے اور یہ روشنی جس کی آنکھوں میں پڑجائے وہ عارضی طور پر دیکھنے کی صلاحیت سے محروم ہوجاتا ہے اور دماغ بھی تقریباً ماﺅف ہوجاتا ہے۔’رے گن‘ کو زمینی پیش قدمی کے وقت استعمال کیا جائے گا تاکہ دشمن کے سپاہی بڑھتے ہوئے روسی سپاہیوں کو روک نہ سکیں، جبکہ اسے دشمن کے جاسوسوں اور نگران سپاہیوں کی نظر بندی کیلئے بھی استعمال کیا جاسکتا ہے۔

Grach کہلانے والے اس Visual optical jammer میں چار پروجیکٹر ہیں جو طاقتور شعاعیں خارج کرتے ہیں۔ اسے رواں ہفتے روس میں ہونے والی ایک فوجی نمائش میں پہلی دفعہ متعارف کروایا گیا۔

لندن مسلمانوں کے خلاف نفرت پر مبنی جرائم کا اندراج علیحدہ کرنے کی ہدایت

لندن: برطانیہ میں مسلمانوں کے خلاف نفرت آمیز کارروائیوں کا اندراج علیحدہ ہوگا۔ پاکستانی نژاد برطانوی وزیر برائے ہوم آفس لارڈ طارق احمد کاکہنا ہےکہ برطانوی وزیر اعظم ڈیوڈ کیمرون نے اسلام مخالفت میں نفرت پر مبنی جرائم سے مسلمانوں کو تحفظ دلانے کیلئے اپنے تمام وعدے پورے کردیئے ہیں۔ برطانوی وزیر کاکہنا تھاکہ یہ بہت بڑی پیش رفت ہےکہ کنزرویٹو حکومت نے انگلینڈ اور ویلز میں پولیس کو مسلمانوں کے خلاف نفرت پر مبنی جرائم کا اندراج علیحدہ کرنے کی ہدایت کی ہے اوربالکل یہودی مخالف جرائم کی طرح ان سے سنجیدگی سے نمٹنے کا حکم دیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ مسلمانوں پر محض انکے اسلام سے منسلک ہونے کی بنیاد پر حملہ کرنا جرم ہوگا ۔ انہوں نے پارٹی کی ساتھی رکن بیرونیس سعیدہ وارثی کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئےکہاکہ انہوں نے اپنے دور وزارت میں برطانوی محکموں کو یہ بات باور کرانے میں اہم کردار ادا کیا کہ مسلمانوں کے خلاف نفرت پر مبنی جرائم ایک سنگین معاملہ ہے اور مسلمان برادری کو تحفظ ملنا چاہیے۔ لارڈ طارق کاکہنا تھاکہ انہوں نے برطانیہ کی جانب سے حالیہ اقدامات کیلئے کوششیں کیں۔ انہوں نے بتایاکہ مسلمان مخالف جرائم کا علیحدہ سے اندراج کنزرویٹو پارٹی کے منشور میں شامل تھا، جوکہ مسلمانوں کو یہ باور کرانے کیلئے تھاکہ برطانوی حکومت محض مسلمان شدت پسندوں کے خلاف ہی کارروائی نہیں کررہی بلکہ اس کے اقدامات متوازن ہیں ۔2013-14میں پولیس کے اعدادوشمار کے مطابق مذہبی مخالفت پر مبنی جرائم کی شرح میں 45فیصد تک اضافہ ہوا، نسلی مخالفت پر مبنی جرائم میں 4 فیصد اضافہ دیکھنے میں آیا۔ مسلمانوں کے خلاف جرائم کے علیحدہ اندراج کے ذریعے پولیس ، استغاثہ، مقامی حکام اور دیگر برادریوں کو مسلمانوں کے خلاف نفرت پر مبنی جرائم میں اضافے کے بارےمیں بہتر طور پر آگاہی حاصل ہوگی۔ اس کے ذریعے انگلینڈ اور ویلز میں مسلمانوں کے خلاف نفرت آمیز کارروائیوں کی درست شرح بھی معلوم ہوگی۔

گائے ذبح کریں نہ ہی بڑا گوشت کھائیں وشوا ہندو کی مسلمانوں کو دھمکی

جموں:  مقبوضہ کشمیر میں ہندو انتہاپسند تنظیم وشوا ہندو پریشد نے مسلمانوں کو دھمکی دی ہے کہ وہ گائے ذبح کریں نہ ہی بڑا گوشت کھائیں ورنہ سنگین صورتحال کا سامنا کرنا پڑے گا۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق وشواہندو پریشد مقبوضہ کشمیر کے سرپرست راماکانت دوبے نے جموں میں جاری بیان میں کہا کہ گائے کے ذبیح یا بڑا گوشت کھانے پر مسلمانوں کو سنگین نتائج کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ واضح رہے کہ اس سے قبل مقبوضہ کشمیر اسمبلی میں بھی انتہا پسند ہندوؤں کی جانب سے گائے کے ذبح کرنے کی حمایت پر ایک مسلم رکن کو تشدد کا نشانہ بنایا تھا۔

سیکولر بھارت انتہا پسند ہندو ریاست میں تبدیل

نئی دہلی: سیکولر بھارت اب ایک انتہا پسند ہندو ریاست میں تبدیل ہورہا ہے۔ ہندو انتہا پسندتنظیموں کی جانب سے صرف پاکستانی شخصیات کی مخالف نہیں کی جاتی ہے ، بلکہ بھارتی مسلمان بھی ان تنظیموں کے شر سے محفوظ نہیں، جنونی ہندوں کے اس خطرے کو بھانپتے ہوئے بھارتی دانشوروں نے آوازیں اٹھانا شروع کردی ہیں۔ پنجابی ادیب دلیپ کورنے بھی بھارت کے چوتھے بڑے سویلین پدما شری ایوارڈ واپس کردیا۔مودی سرکاری کی چھترچھایہ میں گائے کے گوشت کے معاملے پربیگناہ اخلاق کاقتل ہویااقلیتوں کیخلاف من مانی کارروائیاں، شیوسینا کی شرمناک حرکتوں نے بھارت میں دانشور حلقوں کو بھی جنجھوڑ کررکھ دیا ہے۔ اب تک کئی ادیب، شاعر، فنکار اور دانشور اپنیاعزازات مودی سرکارکوواپس کرچکے ہیں، بھارتی شاعر منگالیش دبرال، کشمیری ادیب غلام نبی خیال، تھیٹر آرٹسٹ مایا کرشنا راؤ، ادیب ادے پرکاش، ناینترا سہگل، اشوک واجپائی، رحمان عباس ، سارہ جوزف، اتمجیت سنگھ اور دیگر شامل ہیں۔ ساہیتہ اکیڈمی کے عہدیدار بھی مستعفی ہو چکے ہیں۔ادھر پارلیمینٹ اراکین نے بھی بھارت میں خورشید قصوری اورگلوکارغلام علی کی تقریبات میں انتہا پسند تنظیم کی رکاوٹوں کی سخت مذمت کی ہے۔ سیکولر بھارت اب ایک انتہا پسند ہندو ریاست میں تبدیل ہورہا ہے۔ بھارتی دانشور اور سول سوسائٹی اس خطرے کو بھانپ چکے ہیں

پیاسی بلی کو پانی پلانے پر گارڈ کو دنیا میں بھی صلہ مل گیا.

جدہ : سعودی ریسٹورنٹ نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ اپنے ایک گارڈ کو ایک سال تک مفت کھانا دے گا۔مذکورہ گارڈ ایک پیاسی بلی کو پانی پلاتے ہوئے سی سی ٹی وی کیمرے میں دیکھا گیا تھا۔ جدہ میں واقع ریسٹورنٹ کے مالک کا کہنا ہے کہ میں نے شوشل میڈیا پر گارڈ کی ویڈیو دیکھی ، جس میں وہ اپنے ہاتھوں کا پیالہ بناکر پیاسی بلی کو پانی پلا رہا ہے۔ مالک نے کہا کہ میں گارڈ کے اس طرز عمل سے بہت متاثر ہوا ہوں۔ عربی اخبار عکاز کے مطابق ریسٹورنٹ کے مالک عبداللہ ال ھارتھی کا کہنا ہے کہ اگر گارڈ جدہ میں ہوگا تو میں اسے ایک سال تک مفت کھانا دوں گا۔ اگر جدہ سے باہر ہوا تو کھانے کے برابر رقم دوں گا۔

بھارت میں مردہ اچانک زندہ ہوگیا.

ممبئی: بھارت کے صنعتی شہر ممبئی میں ایک شخص کو مردہ قرار دے کر ڈاکٹروں نے لاش کو پوسٹ مارٹم کے لیے بھیج دیا لیکن پوسٹ مارٹم سے عین قبل ’مردہ‘ اچانک زندہ ہوگیا۔ بھارت کے صنعتی شہر ممبئی کے علاقے سائن کے ایک اسپتال میں پوسٹ مارٹم سے عین قبل ایک لاش کے زندہ ہونے کا منفرد واقعہ پیش آیا، لک مانیہ تلک اسپتال میں 42 سالہ شخص پرشانت کو پوسٹ مارٹم کے لئے لایا گیا اور پوسٹ مارٹم کا عمل شروع ہونے ہی والا تھا کہ پرشانت نے اپنی آنکھیں کھول کر ڈاکٹر اوراسپتال کے دیگر ملازمین کو حیرت میں ڈال دیا۔ اسپتال کے ڈین ڈاکٹر سلیمان مرچنٹ کے مطابق پوسٹ مارٹم کے لئے پولیس اسپتال میں لاش لے کر آئی اور کہا کہ ہم ایک مردہ لاش لائے ہیں جس کا پوسٹ مارٹم فوری طور پر ہونا ہے کیونکہ ہمیں وی آئی پی کی سیکیورٹی کے لیے جلدی جانا ہے اس لئے ڈیوٹی پر موجود ڈاکٹرکو جلد بازی میں ہی چیک اپ کرنا پڑا جس کی وجہ سے یہ غفلت ہوگئی۔ ڈاکٹرسلیمان کا کہنا ہے کہ مریض کی حالت میں بہتری آرہی ہے جسے فی الحال آئی سی یو میں سخت نگرانی میں رکھا گیا ہے۔

نئی نویلی دُلہن نے موبائل چھین لینے پر خودکشی کرلی۔

نئی دلی: سوشل میڈیا جہاں ایک طرف رشتوں کو قریب لا رہا ہے تو دوسری طرف لوگوں کے درمیان غلط فہمیاں پیدا کرکے فاصلے بھی بڑھا رہا ہے اور کہیں تو لوگوں کی زندگی کے خاتمے کا باعث بھی بن رہا ہے ایسا ہی کچھ ہوا بھارت میں جہاں ایک نئی نویلی دُلہن نے شوہر کی جانب سے واٹس ایپ اور فیس بک کے استعمال سے منع کرنے کے بعد موبائل چھین لینے پر خودکشی کرلی۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق بھارتی ریاست کیرالہ کی رہنے والی اپارنا نامی لڑکی شادی کے بعد بھی خود کو فیس بک اور واٹس ایپ سے دور نہ کرسکی جس پر اس کا شوہر کمار اکثر ناراض رہتا اور اسے یہ بات بالکل بھی پسند نہ آتی اس لیے وہ اپنی بیوی کو فیس بک کے استعمال سے منع کرتا رہتا۔ گزشتہ روز جب وہ گھر لوٹا تو اس کی بیوی فیس بک پر چیٹنگ پر مصروف تھی جس پر شوہر طیش میں آگیا اور اس نے غصے میں آکر بیوی سے موبائل فون چھین لیا۔ موبائل فون چھیننے پر بیوی اس سے سخت ناراض ہوگئی اور اس نے اس تمام صورتحال سے اپنی بھائی کو آگاہ کیا اور خود کو ایک کمرے میں بند کرلیا جس کے بعد لڑکی کے رشتے داروں نے بہت کوشش کی کہ وہ دروازہ کھولے لیکن اندر سے کوئی جواب نہ آیا جس پر رشتے داروں نے دروازہ توڑا تو اندر کا منظر ان کے لیے دل دہلا دینے والا تھا کیونکہ اس نئی نویلی دُلہن نے خود کو چھت کے پنکھے سے لٹکا کر خوکشی کر لی تھی۔ اپنی نئی نویلی دلہن کی اس طرح اچانک موت سے کمار نے انتہائی دلبرداشتہ ہو کر خود کشی کرنے کی کوشش کی تاہم رشتے داروں نے اسے ایسا کرنے سے روک دیا جب کہ پولیس نے موقع پر پہنچ کر واقعے کی تفتیش کا آغازکردیا ہے۔

Google Analytics Alternative