بین الاقوامی

بھارتی فورسز کی فائرنگ سے مزید 3 کشمیری نوجوان شہید

مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی افواج نے ضلع کپواڑہ میں فائرنگ کر کے مزید تین نوجوانوں کو شہید کر دیا۔

کشمیر میڈیا سروس کی جانب سے جاری بیان کے مطابق بھارتی افواج نے ریاستی دہشت گردی کا مظاہرہ کرتے ہوئے مقبوضہ کشمیر کے ضلع کپواڑہ میں سرچ آپریشن کی آڑ میں مچھل کے علاقے میں تین نوجوانوں کو فائرنگ کر کے شہید کر دیا۔

رپورٹ کے مطابق قابض بھارتی افواج کی جانب سے تاحال علاقے کا محاصرہ کر کے سرچ آپریشن جاری ہے۔

خیال رہے کہ چند روز قبل بھی بھارتی افواج نے مقبوضہ کشمیر کے ضلع کپواڑہ میں فائرنگ کر کے دو نوجوانوں کو شہید کر دیا تھا۔

گوئٹے مالا: آتش فشاں پھٹنے سے ہلاکتوں کی تعداد 75 ہوگئی، 192 افراد لاپتہ

گوئٹے مالا سٹی: گوئٹے مالا میں فیوگو نامی آتش فشاں پھٹنے سے ہلاکتوں کی تعداد 75 ہوگئی جبکہ 192 افراد لاپتہ ہیں۔

واضح رہے کہ اتوار کو آتش فشاں پھٹنے سے راکھ اور دھویں کے بادل فضا میں 6.2 میل (10 کلومیٹر) تک گئے تھے، جس کے بعد ماہرین نے کہا تھا کہ مستقبل قریب میں مزید لاوا پھٹنے کے امکانات نہیں، تاہم منگل کو دوبارہ پھٹنے والے آتش فشاں نے سب کو حیران کردیا۔

خبر رساں ادارے رائٹرز کے مطابق گوئٹے مالا میں آتش فشاں پھٹنے سے متاثرہ علاقہ دھول اور گرد سے اَٹ گیا اور ہر طرف تباہی کا منظر نظر آنے لگا۔

انتظامیہ کی جانب سے متاثرہ علاقے میں ملبہ ہٹا کر لاپتہ افراد کی تلاش کا کام جاری ہے جبکہ ہزاروں افراد کو عارضی پناہ گاہوں میں منتقل کردیا گیا ہے۔

اتوار کو آتش فشاں پھٹنے سے راکھ اور دھویں کے بادل فضا میں 6.2 میل (10 کلومیٹر) تک گئے تھے—۔فوٹو/ اے پی

فیوگو آتش فشاں، وسطی امریکی ممالک میں واقع 34 فعال آتش فشاں میں سے ایک ہے۔

اتوار کو پھٹنے والے آتش فشاں سے ہونے والی تباہی 1974 کے بعد سے شدید ترین ہے، جس سے نکلنے والا لاوا قریبی علاقوں میں بہہ رہا ہے۔

چین میں خام لوہے کی کان میں دھماکے سے 12 کان کن ہلاک

بیجنگ: چین کے شمالی علاقے میں واقع کان میں بارودی مواد پھٹنے سے 12 کان کن ہلاک ہو گئے۔ 

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق شمالی چین کے صوبے لیاؤننگ میں واقع خام لوہے کی کان کے داخلی راستے پر بارودی مواد پھٹ گیا۔ بارودی مواد کو ایک ٹرک کے ذریعے لایا گیا تھا جسے کان کے اندر لے جانا تھا تاہم داخلی راستے میں ہی بارودی مواد پھٹنے سے کان دب گئی جس کے نتیجے میں 12 کان کن ہلاک ہوگئے جب کہ 25 کان کنوں کو زندہ نکال لیا گیا۔ دو کان کن ابھی بھی لاپتہ ہیں۔

واضح رہے چین کی منافع بخش صنعت کان کنی میں حفاظتی اقدامات اپنائے نہیں جاتے ہیں جس کی وجہ سے ایسے حادثات معمول بن گئے ہیں گزشتہ برس مئی میں ایک کان میں گیس کے اخراج کے باعث 18 کان کن ہلاک ہو گئے تھے اسی طرح دسمبر میں ایک کان میں دھماکے سے 58 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

چوہدری نثار نے این اے 59 سے کاغذات نامزدگی حاصل کرلئے

 راولپنڈی: مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور سابق وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے این اے 59 سے کاغذات نامزدگی حاصل کرلئے۔

چوہدری نثار علی خان نے این اے 59 راولپنڈی سے کاغذات نامزدگی حاصل کرلئے ہیں جب کہ پی پی پی اور پی ٹی آئی کے امیدواروں نے بھی اسی حلقے سے کاغذات نامزدگی لے لیے ہیں۔ این اے 59 سے چوہدری نثار کے مقابلے میں تحریک انصاف کے غلام سرور خان اور پاکستان پیپلز پارٹی کے چوہدری کامران اسلم نے کاغذات نامزدگی حاصل کیے۔ امیدواروں کی جانب سے ان کے عملے نے کاغذات نامزدگی حاصل کیے۔

چوہدری نثار اور نواز شریف میں اختلافات کی خبریں گرم ہیں جب کہ گزشتہ دنوں شہباز شریف نے کہا تھا کہ چوہدری نثار میں بچپنا ہے اور بچے کو منانا پڑتا ہے۔ شہباز شریف کی اس بات کا چوہدری نثار نے کافی برا مناتے ہوئے سخت ردعمل دیا تھا۔ انہوں نے کہا تھا کہ شہباز شریف کو بچپنے اور سنجیدہ عمل میں فرق کا احساس ہی نہیں، بچپنا وہ عمل ہے جو ان کی پارٹی قیادت اس وقت روا رکھے ہوئے ہے جب کہ غیر سنجیدگی یہ ہے کہ بطور پارٹی صدر وہ اس کے مداوے کے لئے کچھ نہیں کر پا رہے۔

واضح رہے کہ سابق وزیرِ داخلہ چوہدری نثار نے قومی اسمبلی کے حلقہ 59 جبکہ صوبائی اسمبلی کے پی پی 10 اور 14 سے الیکشن میں حصہ لینے کا اعلان کیا تھا۔

نائیجیریا کی مسجد میں افطار کے دوران 3 خودکش حملے،10 افراد جاں بحق

دیفا: نائیجیریا کی ایک مسجد میں افطار کے دوران یکے بعد دیگرے تین خودکش حملوں میں کم ازکم 10 افراد جاں بحق اور درجنوں زخمی ہوگئے۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق افریقی ملک نائیجیریا کے جنوب مشرقی شہر دیفا میں واقع مقامی مسجد میں تین خودکش حملے کیے گئے، حملہ آوروں نے افطار کرنے والوں کو دہشت گردی کا نشانہ بنایا۔

حکام کا کہنا ہے کہ حملہ آوروں میں دو خواتین اور ایک مرد شامل تھے جنہوں نے مسجد کے اندر داخل ہوکر افطار میں مصروف افراد کے درمیان خود کو دھماکا خیز مواد سے اڑادیا نتیجے میں 10 افراد جاں بحق اور 80 سے زخمی ہوئے۔

حکام کے مطابق زخمیوں میں بعض کی حالت تشویش ناک ہے جن کی جان بچانے کی کوششیں کی جارہی ہیں تاہم  بعض زخمیوں کی حالت نازک ہونے کی وجہ سے اموات میں اضافے کا خدشہ ہے۔

ابتدائی طور پر کسی عسکریت پسند گروپ یا تنظیم نے واقعے کی ذمہ داری قبول نہیں کی تاہم نائیجیریا، چاڈ اور کیمرون شدت پسند تنظیم بوکوحرام کے گڑھ سمجھے جاتے ہیں جہاں یہ تنظیم ماضی میں خودکش حملوں کی ذمہ داری قبول کرتی رہی ہے۔

بھارتی فضائیہ کا لڑاکا طیارہ گر کر تباہ

نئی دہلی: انڈین ایئر فورس کا ایک لڑاکا طیارہ دوران پرواز گر کر تباہ ہو گیا ہے جس کے نتیجے میں پائلٹ ایئرکموڈور سنجے چوہان ہلاک ہوگئے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق بھارتی فضائیہ کا جیگوار فائٹر جیٹ طیارہ دوران پرواز کچھ کے علاقے میں گر کر تباہ ہوگیا۔ حادثے میں پائلٹ ایئر کموڈور سنجے چوہان ہلاک ہو گئے۔ تاحال طیارے کے گرنے کی وجہ کا تعین نہیں ہو سکا ہے۔ بھارتی فضائیہ نے حادثے کی وجوہات جاننے کے لیے ایک تحقیقاتی کمیٹی قائم کردی ہے۔

بھارتی ایئر فضائیہ کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ ایئر کموڈور سنجے چوہان نے جامنگر ایئر بیس سے معمول کی مشق کے لیے  پرواز بھری تھی کہ کچھ کے علاقے مندرا میں طیارہ گر کر تباہ ہو گیا۔ ایئرکموڈور سنجے چوہان اس حادثے میں شدید زخمی ہوگئے جو دوران علاج جانبر نہ ہوسکے۔ تحقیقاتی کمیٹی کی رپورٹ آنے تک حادثے کی وجوہات کے بارے میں کچھ کہنا قبل از وقت ہوگا۔

واضح رہے کہ رواں برس بھارتی فضائیہ کا طیارہ گرنے کا یہ چوتھا واقعہ ہے اس سے قبل مارچ میں بھارتی فضائیہ کا ایک طیارہ آسام اور ایک کشمیر کے علاقے میں گر کر تباہ ہو گیا تھا جس کے نتیجے میں 3 پائلٹ موقع پر ہی ہلاک ہوگئے تھے جب کے اپریل میں اترکھنڈ کے علاقے میں طیارہ ایم آئی 17 گر گیا تھا۔

اردن: شاہ عبداللہ نے نیا وزیر اعظم نامزد کردیا

اردن کے شاہ عبداللہ دوم نے گزشتہ روز ملک میں جاری حکومت مخالف احتجاج کے پیش نظر سابق وزیراعظم کے استعفے کو قبول کرنے کے بعد آج نئے وزیر اعظم کو نامزد کردیا۔

اردن کی کابینہ کے رکن، ہارورڈ یونیورسٹی سے تعلیم یافتہ اور ورلڈ بینک کے سابق سینیئر حکام عمر رزاز کو ہانی الملکی کی جگہ نامزد کیا گیا ہے۔

عمر رزاز نے میساچوسٹس اسنٹیٹیوٹ آف ٹیکنالوجی سے 2002 سے 2006 کے دوران تعلیم حاصل کی جس کے بعد وہ 2006 سے 2010 تک لبنان میں ورلڈ بینک کے کنٹری منیجر کے عہدے پر فائز رہے۔

بعد ازاں عمر رزاز 2011 سے 2012 تک اردن واپس آکر سوشل سیکیورٹی کارپوریشن کے سربراہ بھی رہے۔

یہ بات ابھی واضح نہیں ہے کہ عمر رزاز کو کتنا اصلاحاتی مینڈیٹ دیا جائے گا کیونکہ پالیسی کے امور پر حتمی فیصلے کا اختیار صرف شاہ عبداللہ کے پاس ہے اور وہ سیاسی حکومت سے بالا طاقت کے حامل ہیں۔

عمر رزاز کی نامزدگی کے لیٹر میں واضح طور پر ٹیکس نظام پر نظر ثانی کرنے اور نئے ٹیکس بل کو پارلیمنٹ، یونین اور دیگر گروہوں کے ساتھ مل کر پیش کرنے کا کہا گیا ہے۔

احتجاج جاری

انکم ٹیکس بل کے خلاف احتجاج کرنے والے مظاہرین کا کہنا تھا کہ وہ مطالبات پورے کیے جانے تک حکومت پر دبائو برقرار رکھیں گے اور اس حوالے سے انہوں نے کل (بدھ کو) ایک روزہ ہڑتال کا اعلان بھی کر رکھا ہے۔

ناقدین کا کہنا تھا کہ ٹیکس میں اضافے سے صرف غریب اور مڈل کلاس طبقے کو نقصان پہنچایا جارہا ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ ماہ اردن حکومت کی جانب سے انکم ٹیکس قانون پر مسودہ تیار کیا گیا تھا جو ابھی تک پارلیمان سے منظور نہیں ہوا، تاہم اس قانون کا مقصد ملازمین پر 5 فیصد جبکہ کمپنیز پر 20 سے 40 فیصد کے درمیان ٹیکس بڑھانا تھا۔

حکومت کی جانب سے مسلسل اقتصادی اصلاحات میں یہ حالیہ اقدام ہے کیونکہ 2016 میں عمان نے 3 سال کی کریڈٹ لائن پر بین الاقوامی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف ) سے 72 کروڑ 30 لاکھ ڈالر وصول کیے تھے۔

اس کے بعد جنوری سے اردن میں بڑے پیمانے پر بےروزگاری میں اضافہ ہوا تھا اور روز مرہ کی اشیا جیسے ڈبل روٹی کی قیمتوں میں اضافہ ہوا تھا اور بنیادی اشیا پر اضافی ٹیکسز لگائے گئے تھے۔

اسی طرح سال کے آغاز سے 5 مرتبہ ایندھن کی قیمتیں بڑھائی گئی تھیں جبکہ بجلی کے بلوں میں بھی 55 فیصد اضافہ ہوا تھا۔

آئی ایم ایف کی جانب سے دی گئی رقوم کے بعد اردن حکومت کی جانب سے اٹھائے گئے اقدامات کے باعث ہونے والا احتجاج 5 برسوں میں سب سے بڑا معاشی احتجاج ہے۔

تیونس: کشتی ڈوبنے سے ہلاک مہاجرین کی تعداد 112 ہوگئی

تیونس کے سمندر میں گزشتہ ہفتے مہاجرین کی کشتی ڈوبنے سے ہلاکتوں کی تعداد 112 ہوگئی۔

اقوام متحدہ کے ادارہ برائے مہاجرین (یو این ایچ سی آر) اور انٹرنیشنل آرگنائزیشن فار مائیگریشن کی تازہ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مہاجرین کی کشتی گزشتہ ہفتے تیونس کے ساحلی شہر صفاقس کے قریب خرابی کے باعث ڈوب گئی تھی۔

تیونس کے حکام نے ابتدائی طور پر 46 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کی تھی تاہم درجنوں افراد لاپتہ تھے۔

یواین ایچ سی آر کے ترجمان ولیم اسپنڈر کا کہنا تھا کہ 52 افراد کی ہلاکت کی تصدیق ہوئی ہے اور خیال ہے کہ 60 دیگر افراد بھی جاں بحق ہوچکے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ موسم کی خرابی کے باعث امدادی کاموں کو معطل کردیا گیا ہے۔

خیال رہے کہ یواین ایچ سی آر نے اس حادثے سے قبل اپنی ایک رپورٹ میں کہا تھا کہ رواں برس یورپ جانے کی کوشش کے دوران 646 افراد جان سے دھو بیٹھے ہیں۔

انٹرنیشنل آرگنائزیشن فار مائیگریشن کے ترجمان لیونارڈ ڈوئیل کا کہنا تھا کہ 60 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق ہوئی ہے اور 52 دیگر لاپتہ افراد کے حوالے سے یہی تصور کیا جارہا ہے کہ وہ صفاقس میں پیش آنے والے حادثے میں جاں بحق ہوچکے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اس حادثے میں 68 افراد بچ گئے ہیں۔

یاد رہے کہ انٹرنیشنل آرگنائزیشن فار مائیگریشن کے ترجمان نے ابتدائی طور پر سوشل میڈیا میں اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ 70 سے زائد افراد کو بچالیا گیا ہے۔

لیونارڈ ڈوئیل نے کہا کہ ہلاکتوں کی تعداد کے مطابق یہ حادثہ رواں سال کا بدترین حادثہ ہے جبکہ رواں سال ہی لیبیا کے سمندر میں جنوری اور فروری میں کشتی ڈوبنے سے 100،100 افراد جاں بحق ہوئے تھے۔

Google Analytics Alternative