- الإعلانات -

اب مقامی ہتھیاروں کی مدد سے جنگ جیتیں گے، بھارتی آرمی چیف کی بڑھک

نئی دہلی: بھارتی آرمی چیف بپن راوت اور نیشنل سیکیورٹی ایڈوائزر اجیت دوول نے دعویٰ کیا ہے کہ بھارت اپنی اگلی جنگ مقامی طور پر تیار کردہ ہتھیاروں سے نہ صرف لڑے گا بلکہ اس جنگ میں اپنے دشمنوں کو شکستِ فاش دے کر اپنی عسکری برتری ثابت بھی کردے گا۔

یہ دونوں اعلیٰ اور ذمہ دار بھارتی عہدیداران نئی دہلی میں ’’ڈیفنس ریسرچ اینڈ ڈیویلپمنٹ آرگنازئزیشن‘‘ (ڈی آر ڈی او) کی 41 ویں ڈائریکٹرز کانفرنس سے خطاب کررہے تھے۔

واضح رہے کہ یہ بیان ایک ایسے وقت میں دیا گیا ہے جب فرانس سے خریدے گئے 36 رافیل لڑاکا طیاروں میں سے پہلا طیارہ بھارتی فضائیہ کے سپرد کیا گیا ہے اور بھارتی ساختہ جیٹ انجن ’’کاویری‘‘ کے منصوبے پر بھی کام عملاً بند پڑا ہے

بپن راوت کا کہنا تھا کہ بھارتی فوج مستقبل کی جنگ میں استعمال ہونے والے نظاموں کا جائزہ لے رہی ہے جس کےلیے انہیں سائبر، خلائی، لیزر، الیکٹرونک اور روبوٹک ٹیکنالوجیز کے علاوہ مصنوعی ذہانت (آرٹیفیشل انٹیلی جنس) پر بھی کام شروع کرنا ہوگا۔

انڈین آرمی چیف نے بھارت کی فوجی ضروریات کو مقامی ذرائع سے پوری کرنے کے ضمن میں ڈی آر ڈی او کی کاوشوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ اس ادارے کو مستقبل کی جنگ کےلیے ہتھیاروں پر کام کرنے کے علاوہ ایسی ممکنہ جنگوں کےلیے بھی تیاری کرنی چاہیے جن میں دشمن سے دوبدو جھڑپ نہ ہو۔

اجیت دوول نے کسی بھی جنگ میں فتح کےلیے ٹیکنالوجی اور دولت کو اہم ترین عوامل قرار دیتے ہوئے کہا کہ جنگ میں دوسرے نمبر پر آنے والے کےلیے کوئی ٹرافی نہیں ہوتی۔