- الإعلانات -

دہشتگردی میں بھارت کے ملوث ہونے کے شواہد پر مبنی ڈوزیئر اقوام متحدہ میں پیش

اقوام متحدہ میں پاکستان کے مستقل مندوب منیر اکرم نے پاکستان کے خلاف دہشت گردانہ اقدامات میں بھارت کے ملوث ہونے پر مبنی ڈوزیئر اقوام متحدہ (یو این) انڈر سیکرٹری برائے انسداد دہشت گردی کے حوالے کردیا۔

اقوام متحدہ میں پاکستان کے مستقل مندوب منیر اکرم کا کہنا تھا کہ اقوام متحدہ کے انڈر سیکرٹری جنرل برائے انسداد دہشت گردی ولادی میر ورون کوف سے 3 دسمبر کو ملاقات ہوئی۔ انہوں نے بتایا کہ ملاقات میں پاکستان کے خلاف دہشت گردانہ اقدامات میں بھارت کے ملوث ہونے پر مبنی ڈوزیئر ان کے حوالے کیا گیا۔ منیر اکرم کا کہنا تھا کہ یو این انڈر سیکرٹری نے ڈوزیئر کا مطالعہ کرنے کا وعدہ کرتے ہوئے بھارت اور پاکستان کے درمیان کشیدگی میں کمی اور اقوام متحدہ کے چارٹر، سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق مذاکرات سے معاملات حل کرنے پر زور دیا۔

خیال رہے کہ گزشتہ دنوں وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے قومی سلامتی ڈاکٹر معید یوسف نے بھارت کے پاکستان میں دہشت گردی میں ملوث ہونے کے نئے ثبوت پیش کیے تھے۔ اس کے علاوہ پاک فوج کے ترجمان میجر جنرل بابر افتخار نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا تھا کہ پاکستان دہشت گردی میں بھارت کے ملوث ہونےکا ڈوزیئر میں ثبوت سامنے لایا، پاکستان بھارت کے انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں میں ملوث ہونے کے ثبوت بھی سامنے لایا، بھارتی ریاستی دہشت گردی کے ثبوتوں کو عالمی برادری نے بہت سنجیدہ لیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ڈوزیئر سامنے آنے پر دنیا اب بھارتی اسپانسرڈ دہشتگردی پر بات کر رہی ہے، تمام تر بھارتی کوششوں کے باوجود عالمی فورمز اور ذرائع ابلاغ پر بحث چل نکلی ہے۔ ترجمان پاک فوج نے بتایا کہ دفتر خارجہ نے ڈوزیئر کو پی 5 (سلامتی کونسل کے 5 مستقل اراکین) کو پیش کیا، پھر اقوام متحدہ سیکرٹری جنرل کو پیش کیا گیا، ہم یہاں رکیں گے نہیں، عالمی سطح پر اس سنگین معاملے کو مزید آگے لے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان نے بھارتی دہشتگردی کے ناقابل تردید ثبوت پیش کر کے دنیا کے سامنے بھارت کا مکرہ چہرہ بے نقاب کر دیا ہے۔