- الإعلانات -

کپتان بابر اعظم انگلش ٹیم تبدیل ہونے پر مایوس

پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے پہلے ون ڈے میچ سے قبل انگلینڈ کی پوری ٹیم کے تبدیل ہونے پر مایوسی کا اظہار کیا ہے کہ اور کہا ہے کہ ہم اپنا مائنڈ سیٹ تبدیل نہیں کریں گے اور مثبت انداز میں کرکٹ کھیل کر جیتیں گے۔

یاد رہے کہ پاکستان کے خلاف سیریز کے لیے منتخب انگلش ٹیم کے سات ممبران میں کورونا وائرس کی تشخیص کے بعد انگلینڈ نے پوری ٹیم کو قرنطینہ کرکے نئی ٹیم منتخب کی ہے جس کی قیادت بین اسٹوک کو سونپی گئی ہے۔ پہلے ون ڈے میچ سے قبل کارڈف میں آن لائن پریس کانفرنس کرتے ہوئے بابر اعظم نے کہا کہ جو صورتحال پیدا ہوئی یہ کوئی آئیڈیل نہیں تھی اور اس صورتحال میں حریف ٹیم کے تبدیل ہونے سے مایوسی ہوئی ہے لیکن ان حالات کو سمجھنا چاہیےکہ کووڈ کے غیر معمولی حالات کا سامنا ہے اور ہم فینز کے لیے کرکٹ کھیل رہے ہیں۔

قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان کا کہنا تھا کہ ڈیڑھ سال سے ہم بائیو سیکور ببل میں ہیں پاکستان کرکٹ بورڈ اور ای سی بی نے اعتماد دیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ میں اپنے کھلاڑیوں کو کریڈٹ دوں گا جو ان حالات میں مثبت سوچ رہے ہیں۔ بابر اعظم نے مزید کہا کہ ہم پروفیشنل ہیں اور اس طرح کی چیزوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے ، کرکٹ ہماری ترجیح ہے ، جب انگلینڈ کے کیمپ میں کووڈ 19 کیسز کا پتہ چلا تو ہمارے ذہن میں یہ نہیں آیا تھا کہ ہمیں کرکٹ نہیں کھیلنی ،ہمارا سارا فوکس کل کے میچ پر ہے اور ہم مثبت انداز سے میدان میں اتریں گے۔

بابر اعظم نے کہا کہ ہمارے لیے سیریز بہت اہم ہے ، بد قسمتی سے ہم نے جن کھلاڑیوں کے لیے پلان بنایا تھا اب وہ کھلاڑی تبدیل ہوگئے مگر ہمارے اینالسٹ نے نئے کھلاڑیوں کے لیے نیا پلان دیا ہے اور ہمارے فوکس میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ، انگلینڈ کی نمبر ون ٹیم ہے اور ہمیں بے خوف کرکٹ کھیلنا پڑے گی۔