- الإعلانات -

عمران خان وہ شخص ہے جو جس ہاتھ سے کھاتا ہے ، اسی کو کاٹتا ہے، وزیر دفاع

وزیر دفاع خواجہ آصف کا کہنا ہے کہ آخر بلی تھیلے سے باہر آ گئی ، عمران خان وہ شخص ہے جو جس ہاتھ سے کھاتا ہے ، اسی کو کاٹتا ہے۔
وزیر دفاع خواجہ آصف نے گزشتہ روز عمران خان کی صحافیوں سے کی گئی بات چیت کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ سابق وزیر اعظم کا یہ پروجیکٹ 2011 میں شروع ہوا، اسٹیبلشمنٹ نے اس بندے کو سپورٹ کرنے کے لیے اپنی ریپوٹیشن بھی داؤ پر لگائی۔

ان کا کہنا تھا کہ آخر بلی تھیلے سے باہر آگئی، عمران خان نے نیوٹرل کرتے کرتے فوج پر براہ راست الزام لگادیا۔ انہیں نیوٹرل ہونے پر تکلیف یہ ہے کہ اس وینٹیلیٹر کے بغیر اُن کی سیاست زندہ نہیں رہ سکتی۔ فوج نے اس کے لیے اپنی ساکھ داؤ پر لگائی اور آج سے میر جعفر کا الزام سننا پڑ رہا ہے۔

خواجہ آصف نے کہا کہ پچھلی حکومت سے گورننس اور معاشی حالات ٹھیک نہیں ہو رہے تھے ، تو اس میں فوج کا کیا قصور؟ فوج نے عمران خان سے یہ تو نہیں کہا تھا کہ اپنے کرونیز کو کھلی چھٹی دو ، خود ہیلی کاپٹر کے رکشے پر بیٹھ کر اٹھانوے کروڑ کا خرچہ کرو۔

اس کے علاوہ وفاقی وزیر قانون رانا ثناء نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہر روز فوجی قیادت کو دعوت دینے والے نے آج پالش اور برش اٹھالیا، ایک دن گالی، اگلے دن قوالی، باس اور چپڑاسی کی سیاسی زندگی کی کل کہانی یہی ہے۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز صحافیوں سے گفتگو میں سابق وزیراعظم و پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان کہا کہ اسٹیبلشمنٹ سے پیغامات آرہےہیں لیکن میں کسی سے بات نہیں کررہا، میں نے ان لوگوں کے نمبر بلاک کر دیے ہیں، جب تک الیکشن کااعلان نہیں ہوتا،تب تک کسی سےبات نہیں ہو گی۔

صحافیوں سے گفتگو میں عمران خان کا کہنا تھاکہ شہباز شریف کے علاوہ بھی کردار میر جعفر اور میر صادق ہیں۔ ان سے سوال کیا گیا کہ کیا آپ ان کرداروں کے نام لیں گے؟ ان کا کہنا تھاکہ ابھی کرداروں کے نام لینے کا وقت نہیں آیا، وقت آنے پر ان کرداروں کے نام لوں گا۔