- الإعلانات -

ملک توڑنے کی باتیں ذہنی بیمار اور فرسٹیٹڈ شخص ہی کرسکتا ہے، طلال چوہدری

مسلم لیگ ن کے رہنما طلال چوہدری نے عمران خان کے ملک کے تین ٹکڑے ہونے کے بیان پر ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ ذہنی بیمار اور فرسٹیٹڈ شخص ہی ایسی باتیں کرسکتا ہے۔ طلال چوہدری نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ یہ شخص کہتا ہے ملک پر ایٹم بم چلا دو، اسے کوئی فرق نہیں پڑتا، یہ کہتا تھا میں اقتدار میں نہیں آتا تو سول نافرمانی کرو، ہنڈی سے پیسے بھیجو یہ کہتا ہے آگ لگا دو۔

ان کا کہنا تھا کہ عمران خان کہتا ہے کہ پاکستان جام کردو، نہ کسی کی روٹی چلے، نہ روزی چلے، نہ پاکستان چلے، کیونکہ یہ اقتدار میں نہیں ہے تاہم اب اس کے خلاف کوئی نہ کوئی ایکشن لینے کا وقت ہے۔ اس کے علاوہ مسلم لیگ ن کے رہنماسینیٹر آصف کرمانی نے کہا کہ عمران خان اقتدار سے محروم ہونے کا بدلہ پاکستان سے لینا چاہتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ 22 کروڑ عوام اور پاک فوج پاکستان کی محافظ ہیں، عدالت عظمیٰ عمران خان کے پاکستان مخالف بیانات کا نوٹس لے۔ واضح رہے کہ سابق وزیراعظم عمران خان نے گزشتہ روز نجی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ اسٹیبلشمنٹ نے درست فیصلے نہ کیے تو فوج تباہ ہو جائے گی اور پاکستان کے تین ٹکڑے ہوں گے۔

عمران خان کا کہنا تھاکہ ‘ یہ اصل میں پاکستان کا مسئلہ ہے، اسٹیبلشمنٹ کا مسئلہ ہے، اگر اس وقت اسٹیبلشمنٹ صحیح فیصلے نہیں کرے گی تو میں آپ کو لکھ کر دیتا ہوں یہ بھی تباہ ہوں گے اور فوج سب سے پہلے تباہ ہوگی کیونکہ ملک دیوالیہ ہوگا‘۔ ان کا کہنا تھاکہ ان لوگوں کو اقتدار سے نہ نکالا تو ملک کے نیوکلئیر اثاثے چھن جائیں گے اوردرست فیصلے نہ کیے گئے تو پاکستان کے تین ٹکڑے ہوں گے۔