- الإعلانات -

پاکستان نے 20 بھارتی ماہی گیروں کو رہا کر دیا ہے۔

پاکستانی حکومت نے گزشتہ پانچ سالوں سے کراچی کی ملیر جیل میں قید 20 بھارتی ماہی گیروں کو رہا کر دیا ہے اور انہیں پیر کی سہ پہر لاہور پہنچایا جائے گا۔ کراچی میں نیشنل ہائی وے پر واقع ملیر ڈسٹرکٹ جیل لانڈھی کے سپرنٹنڈنٹ محمد ارشد کے مطابق، بیس بھارتی ماہی گیروں کو کورٹ پولیس اور ایدھی فاؤنڈیشن کی انتظامیہ کے حوالے کر دیا گیا ہے۔

فیصل ایدھی کے مطابق 20 ماہی گیروں کو لاہور میں واہگہ بارڈر کراسنگ پر لانے کے تمام اخراجات ایدھی فاؤنڈیشن برداشت کر رہی ہے۔ ترجمان کے مطابق ایدھی فاؤنڈیشن نے ماہی گیروں کو خصوصی بس میں لاہور روانہ کیا ہے۔ ماہی گیر کو جیل پولیس کا ایک دستہ بس پر لے جائے گا۔

سابق ماہی گیروں کے سفر کے اخراجات کے علاوہ اخراجات کی رقم اور کچھ تحائف بھی دیے گئے۔ سرکاری ذرائع کے مطابق، ماہی گیروں کو سرکاری ایجنٹوں نے جون 2018 میں پاکستانی سمندروں میں غیر قانونی طور پر داخل ہونے اور بغیر لائسنس کے مچھلیاں پکڑنے کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔

رہائی پانے والے ماہی گیروں میں کانجی، منو، دانا، جیوا، رمیش، دنیش، دیواسی، میرو، نارائن، بھانرا، لال جی، نانجی، دانش، ابو، یونس، نثار، عقیل، امین، فرید اور انیس شامل ہیں۔