- الإعلانات -

لاہورکالج ووےمن ےونےورسٹی مےں سٹوڈنٹس ڈائرےکٹورےٹ کے اشتراک سے ماﺅں کے عالمی دن کے حوالے سے تقرےب کا انعقاد

محکمہ اطلاعات و ثقافت کے زےر اہتمام لاہورکالج ووےمن ےونےورسٹی مےں سٹوڈنٹس ڈائرےکٹورےٹ کے اشتراک سے ماﺅں کے عالمی دن کے حوالے سے رنگا رنگ تقرےب کا انعقاد کےا گےا ،جس مےں وائس چانسلر رخسانہ نور لاہور کالج ےونےورسٹی اور اےڈےشنل سےکرٹری انفارمےشن ڈےپارٹمنٹ سمن رائے نے خصوصی شرکت کی ۔ تقرےب کے دےگر شرکاءمےں لاہور کالج ےونےورسٹی کے فےکلٹی ممبران ڈپٹی سےکر ٹری انفارمےشن حنا پروےز بٹ اور طالبات کی اےک بڑی تعداد شامل تھی ۔تقرےب کے انعقاد کا مقصد بچےوں کو بحےثےت عورت معاشرے مےں ان کے کردار کی اہمےت اور ضرورت سے آگاہ کرنا اوراولاد کی تربےت مےں والدےن بالخصوص ماں کی اہمےت کو اُجاگر کرنا تھا۔ وائس چانسلر لاہور کالج ےونےورسٹی محترمہ رخسانہ نور نے تقرےب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ رشتوں کے ساتھ محبت کے اظہار کے لےے دنوں کا مخصوص کےا جانا محض اےک علامت ہے حقےقت مےں ہر دن ماں کا دن ہے اور ہر دن باپ کا دن ہے۔ والدےن دُنےا کی وہ واحد ہستی ہےں جو اپنی اولاد کو خواہ وہ اچھی ہو ےا بُری کالی ہو ےا گوری غےر مشروط طور پر چاہتے ہےں اور زندگی کے ہر مقام پر اُن کا ساتھ دےتے ہےں ۔ اُنھوں نے کہا کہ دےن اسلام نے ماں کو باپ پر فضےلت دی ہے کےونکہ وہ تخلےق کے عمل مےں اللہ کی رضا کا ساتھ دےتی ہے اور اس کی مخلوق کو دُنےا مےں لاتی ہے۔ بچہ خواہ کسی بھی ملک ےا قومےت سے تعلق رکھتا ہو پہلی آواز جو وہ نکالتا ہے لفظ مےم ہے اور قدرتی طور پر وہ ماں سے زےادہ قرےب ہوتا ہے اُس کی ےہ قربت ماں کی ذمہ دارےوں کو کئی گُنا بڑھا دےتی ہے کےونکہ ماں کو صرف اپنی اولاد کی نہےں معاشرے کے فرد کی تربےت کرنی ہوتی ہے ۔ معاشرے کے اچھا ےا بُرا ہونے کا انحصار ماں کی تربےت پر پھر خواہ وہ ماں روحانی ہو ےا حقےقی دونوں برابر کی ذمہ دار ہےں۔ رخسانہ نور نے کہا کہ لاہور کالج ےونےورسٹی کا مشن اچھی ماﺅں اور بہترےن بےٹےوں کی تخلےق ہے جو نہ صرف اپنے والدےن کے لےے سکون کا باعث بنےں بلکہ ملک و قوم کی ترقی مےں بھی بھرپور کردار ادا کرےں۔ اےڈےشنل سےکرٹری سمن رائے نے کہا کہ بچوں کی پےدائش سے زےادہ مشکل مرحلہ اُن کی تربےت کا ہے جو ماں کا اصل امتحان ہے اور جس کی وجہ سے اُس کے قدموں مےں جنت رکھی گئی ہے۔ اُنھوں نے کہا کہ محکمہ اطلاعات و ثقافت معلومات کی ترسےل کے ساتھ اپنی ثقافت اور اقدار کے تحفظ کی بھی خدمات سرانجام دے رہا ہے تاکہ تہذےبوں کے تصادم سے پےدا ہونے والی شکست و رےخت سے بچا جا سکے آج کی ےہ تقرےب اسی سلسلے کی اےک کڑی ہے۔ سمن رائے نے طالبعلمی کے دور مےں لاہور کالج مےں اپنے تجربات کا بھی ذکر کےا اور بچےوں کی جدےد خطوط پر تعلےم تربےت کے حوالے سے لاہور کالج ےونےورسٹی کو بہترےن درسگاہ قرار دےا۔اس موقع پر لاہور کالج ےونےورسٹی کی انٹرمےڈےٹ سکشن ہےڈ ماہ رُخ اور شعبہ اردو کی انچارج ڈاکٹر سمےرا نے بھی خطاب کےا۔بی اےس آنرز شعبہ ابلاغےات کی طالبات نے معروف پنجابی شاعر انور مسعود کی پنجابی نظم "شےدے” پرٹےبلو پےش کےا۔ صبےحہ افضل اور سےدہ فضہّ عباس کے گےتوںنے جہاں محفل کی رونق کو چار چاند لگائے وہاں ماں کے ذکر نے بہت سی آنکھوں بھی اشکبار کےا۔آخر مےں ماﺅں کے عالمی دن کے حوالے سے طالبات کے ڈےزائن کردہ کارڈز کا مقابلہ ہوا جس مےں پہلا انعا م شبےنہ کنول دوسرا سمےرا ارشاد اور تےسرا اےمن شاہد نے حاصل کےا۔ وائس چانسلر لاہور کالج ےونےورسٹی نے سمن رائے اور حنا پروےز بٹ کو ےادگاری شےلڈز پےش کےں محکمہ اطلاعات و ثقافت اور لاہور کالج ےونےورسٹی کے سٹوڈنٹس ونگ کو تقرےب کے انعقاد پر مبارکباد پےش کی۔