- الإعلانات -

پشاور کے ریسلر نے ایشین جونیئر ریسلنگ میں چاندی کا تمغہ جیت لیا

پشاور سے تعلق رکھنے والے ریسلر نے 28 سال بعد ایشیاء میں پاکستان کا جھنڈا بلند کر دیا ، عنایت اللہ نے ایشین جونیئر ریسلنگ چیمپیئن شپ میں چاندی کا تمغہ جیت لیا ۔ پشاور کے ریسلر عنایت اللہ نے بنکاک میں ہونے والی ایشین جونیئر اینڈ کیڈٹ ریسلنگ چیمپیئن شپ میں سلور میڈل جیت لیا ۔ خیبر پختونخوا ریسلنگ ایسوسی ایشن نے ان کے اعزاز میں تقریب منعقد کی ، ریسلنگ کے کھیل میں پاکستان 28 سال بعد کوئی میڈل جیت سکا ہے ۔

عنایت اللہ نے ازبکستان ، ایران ، منگولیا اور جاپان کے ریسلرز کو شکست دیکر فائنل تک رسائی حاصل کی اور فائنل میں قازقستان کے ریسلرسے صرف ایک پوائنٹ سے ہار کر سلور میڈل اپنے نام کر لیا ۔ عنایت اللہ نے ایشین ریسلنگ چیمپیئن شپ میں سلور میڈل جیت کر اگلے سال ہونے والی یوتھ اولمپکس کے لیے بھی کوالیفائی کر لیا ہے ۔

پشاور کا یہ نوجوان ریسلر قومی سطح پر 7 جبکہ صوبائی سطح کے مقابلوں میں 4 گولڈ میڈل جیت چکا ہے ۔ نامساعد حالات کے باوجود پشاور کے نوجوان کا یہ کارنامہ اس بات کا ثبوت ہے کہ اس سرزمین میں ٹیلنٹ کی کمی نہیں ، اگر سہولیات اور بہترین کوچنگ فراہم کی جائے تو یہ باصلاحیت کھلاڑی میڈلز کے ڈھیر لگا سکتے ہیں ۔