- الإعلانات -

علاقائی سلامتی کو برقرار رکھنا پاکستان کی اولین ترجیح ہے، خواجہ آصف

بیجنگ: وزیر خارجہ خواجہ آصف نے کسی بھی شدت پسند گروپ کے خلاف نرمی برنتے کی سختی سے تردید کرتے ہوئے کہا کہ علاقائی سلامتی کو برقرار رکھنا پاکستان کی اولین ترجیح ہے۔

بیجنگ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیر خارجہ خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ پاکستان اور چین نے اس بات پر اتفاق کیا ہے کہ افغانستان کے مسئلے کا کوئی فوجی حل نہیں ہے اس لئے اس تنازع کو سیاسی طور پر ہی حل کرنا ہو گا۔ ان کا کہنا تھا کہ خطے میں امن اور سلامتی کے لیے افغانستان میں امن اور سلامتی ناگزیر ہے جس کے لئے چین تعمیری کردار ادا کر رہا ہے جب کہ پاکستان اور چین مل کر افغان مسئلے کے سیاسی حل میں اپنا کردار ادا کر سکتے ہیں۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان اور چین کے درمیان دہشت گردی کے معاملے پر قریبی تعاون ہے اور پاکستان دہشت گردی، انتہا پسندی اور علیحدگی پسندی کے معاملے پر چین کے مضبوط موقف کی حمایت کرتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آپریشن ضرب عضب اور ردالفساد کے تحت تمام دہشت گرد گروپوں کے خلاف بھرپور کارروائیاں کی ہیں جس کے مثبت نتائج برآمد ہوئے ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں خواجہ آصف نے کہا کہ پاکستان خطے میں امن کیلئے افغانستان کے ساتھ اقدامات کی پالیسی پر عمل پیرا رہے گا۔