- الإعلانات -

ایسپرین دانتوں کو خرابی سے روک کر انہیں ازخود مرمت کے قابل بناتی ہے

 لندن: سائنسدانوں نے انکشاف کیا ہے کہ گھروں میں موجود ایک عام دوا ایسپرین نہ صرف دانتوں کو ٹوٹ پھوٹ سے محفوظ رکھتی ہے بلکہ دانتوں کو ازخود مرمت کے قابل بھی بناتی ہے جس سے دانتوں کی مہنگی فلنگ کی ضرورت بھی کم ہوسکتی ہے۔

بلفاسٹ میں کوئنز یونیورسٹی کے ماہرین نے کہا ہے کہ ایسپرین دانتوں کے اہم جزو ’ڈینٹائن‘ کی دوبارہ افزائش میں مدد دیتی ہے جس کی خرابی دانتوں کا ایک عام مرض ہے جس کا شکار دنیا کا ہر تیسرا بالغ شخص ہے۔ صرف برطانیہ میں ہی ہر سال 70 لاکھ کے قریب افراد دانتوں میں فلنگ کراتے ہیں جس پر مجموعی طور پر اربوں روپے خرچ ہوتے ہیں۔

اس پر تحقیق کرنے والے مرکزی سائنسداں ڈاکٹر الکریم کہتے ہیں کہ ہم اپنے رویے میں تھوڑی تبدیلی لا کے دانتوں کے مرض کے سب سے بڑے چیلنج کا خاتمہ کر سکتے ہیں۔ تجربہ گاہوں میں تحقیق سے پتا چلا ہے کہ ایسپرین کا استعمال دانتوں کو اس قابل بناتا ہے کہ وہ ازخود اپنی خرابی دور کرسکیں۔