- الإعلانات -

روہنگیا مہاجرین کی کشتی الٹنے سے جاں بحق افراد کی تعداد 60 ہوگئی

کاکس بازار: میانمار کی ریاست راکھائن میں حکومتی سرپرستی میں ہونے والے مظالم کی وجہ سے نقل مکانی پر مجبور روہنگیا مسلمانوں کی کشتی ڈوبنے سے جاں بحق افراد کی تعداد 60 ہوگئی۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق روہنگیا مہاجرین سمندری راستے سے بنگلا دیش پہنچنے کی کوشش کر رہے تھے کہ ان کی کشتی سمندر کی بے رحم موجوں کی نذر ہو گئی جس کے نتیجے میں 60 افراد جاں بحق ہوگئے جن میں 10 بچے اور 4 خواتین شامل ہیں۔ اقوام متحدہ کی جانب سے بھی 60 افراد کی ہلاکت کی تصدیق کی گئی ہے۔

عینی شاہدین اور زندہ بچ جانے والے افراد نے بتایا کہ کشتی میں 80 افراد سوار تھے۔ ساحل سے تھوڑے فاصلے پر کشتی کسی ابھری ہوئی شے سے ٹکرائی اور الٹ گئی۔ بعد ازاں کشتی کے دو ٹکڑے ہو گئے اور وہ ساحل پر پہنچ گئی۔ ایک مقامی شخص نے بتایا کہ خواتین اور بچے ہماری آنکھوں کے سامنے ڈوبے اور کچھ دیر بعد ان کی لاشیں ساحل پر موجود تھیں۔ بچ جانے والے افراد نے بتایا کہ امدادی کارکنوں کے پہنچنے تک وہ ساری رات بغیر کھائے پیے سمندر کی موجوں سے زندگی کی جنگ لڑتے رہے۔