- الإعلانات -

دنیا بھر میں مہلک کورونا وائرس سے ہلاک ہونے والوں کی تعداد ایک لاکھ 20 ہزار سے تجاوز کرگئی

دنیا بھر میں مہلک کورونا وائرس سے ہلاک ہونے والوں کی تعداد ایک لاکھ 20 ہزار سے تجاوز کرگئی ہے، وائرس سے متاثرہ ملکوں میں مصدقہ مریضوںکی تعداد بڑھ کر 18 لاکھ 80 ہزار ہوگئی ہے، امریکہ میں23ہزارسے زائد، سپین میں 17,756 اور برطانیہ میں 11329 افراد وبا سے لقمہ اجل بن گئے، اٹلی میں ہلاکتوں کی تعداد 20465 ہے جبکہ فرانس میںمرنے والوں کی تعداد 14,967 ہوگئی ہے۔ منگل کو امریکی ذرائع ابلاغ اور برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق امریکہ میں ہلاکتوں کی تعداد 23644ہزار سے زائد ہے۔ امریکی حکام کے مطابق ملک میں وائرس کے 557,663 مصدقہ متاثرین موجود ہیں۔ سپین مصدقہ متاثرین میں دوسرے نمبر پر ہے اور ملک میں کورونا وائرس کے مریضوں کی مجموعی تعداد 169,496 ہے۔ سپین میں کورونا وائرس سے اب تک 17,756 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ اٹلی میں مصدقہ متاثرین کی تعداد ایک لاکھ 56 ہزار سے زائد ہے جبکہ ملک میں ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 20465ہے۔ فرانس میں اب تک 133,672 افراد کورونا وائرس کا شکار ہوچکے ہیں اور یہاں اموات کی تعداد 14,967 ہے۔ جرمنی میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 127,854ہے جبکہ ملک میں ہلاکتوں کی تعداد 3194 ہے۔ برطانیہ میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 85,212 ہے جبکہ 11329 افراد اب تک اس وبا سے ہلاک ہوچکے ہیں۔ چین میں متاثرین کی تعداد 83,213 جبکہ اموات کی تعداد 3,345 ہے۔ ایران میں متاثرین کی تعداد 73,303 ہے۔ کورونا وائرس سے ایران میں اب تک 4,585 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ ترکی میں مصدقہ متاثرین کی تعداد 56,956 ہے اور ہلاکتوں کی تعداد 1296 ہے۔ ادھر بیلجیئم میں مصدقہ متاثرین 30,589 ہیں اور ملک میں اس مہلک وائرس سے ہونے والی اموات کی تعداد 3,903 ہے۔ دریں اثناء امریکی ریاست نیویارک میں ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد 10 ہزار سے بڑھ گئی ہے۔ امریکہ اموات کی تعداد کے حوالے سے سب سے آگے ہے جہاں 23 ہزار سے زیادہ ہلاکتیں ہوئی ہیں۔ کسی بھی دوسرے ملک کے مقابلے میں اس وقت امریکہ میں سب سے زیادہ کورونا وائرس کے تصدیق شدہ کیس موجود ہیں۔ اٹلی میں ہلاکتوں کی تعداد 20465سے تجاوز کرگئی ہے۔ اٹلی میں مزید 566 ہلاکتیں ریکارڈ ہوئیں جس کے بعد ملک میں ہلاکتوں کی تعداد 20465 ہوگئی ہے تاہم ملک میں نئے کیسز کی تعداد اور انتہائی نگہداشت میں رکھے جانے والے مریضوں کی تعداد میں کمی آئی ہے۔ ادھر کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے فرانس میں مزید پابندیاں عائد کر دی گئی ہیں۔ فرانس کے صدر نے ملک میں جاری لاک ڈاؤن کو 11 مئی تک بڑھانے کا اعلان کیا ہے یہ فیصلہ ملک میں کورونا وائرس سیمزید ہلاکتوں کے بعد کیا گیا جبکہ ملک میں ہلاکتوں کی مجمبوعی تعداد 15000 کے قریب پہنچ چکی ہے