Home » 2019 » March » 04

Daily Archives: March 4, 2019

سپریم کورٹ،نوازشریف کی درخواست ضمانت جلد سماعت کیلئے مقررکرنے کی استدعا مسترد

اسلام آباد سپریم کورٹ آف پاکستان نے سابق وزیراعظم نوازشریف کی درخواست ضمانت جلد سماعت کیلئے مقرر کرنے کی استدعا مستردکردی، عدالت نے ریمارکس دیئے ہیں نوازشریف کی درخواست ضمانت کو باری پر سماعت کیلئے مقرر کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ آف پاکستان میں سابق وزیراعظم نوازشریف کی درخواست ضمانت جلد سماعت کیلئے مقررکرنے کی پٹیشن کی سماعت ہوئی۔عدالت نے نوازشریف کی درخواست ضمانت جلد سماعت کیلئے مقرر کرنے کی استدعا مستردکردی، عدالت نے ریمارکس دیئے ہیں نوازشریف کی درخواست ضمانت کو باری پر سماعت کیلئے مقرر کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ نوازشریف نے 6 مارچ کو درخواست ضمانت مقررکرنے کی استدعا کی تھی ،سابق وزیراعظم نے میڈیکل گراﺅنڈکی بنا پر درخواست ضمانت دائر کی تھی ۔

بھارتی دفتر خارجہ نے او آئی سی کے اجلاس کے مشترکہ اعلامیہ کو مسترد کر دیا

نئی دہلی  بھارتی وزیرخارجہ سشما سوارج نے مسئلہ کشمیر کو مکمل طور پر اندرونی معاملہ قرار دیتے ہوئے اسلامی تعاون تنظیم کی جانب سے مقبوضہ کشمیر میں بھارت کے دہشت گردانہ اقدامات کے خلاف منظور کی گئی قرارداد مشترکہ اعلامیہ کو مسترد کر دیا ہے۔

بھارتی دفتر خارجہ کے بیان کے مطابق متحدہ عرب امارات کے شہر ابوظہبی میں اوآئی سی کے وزرائے خارجہ کے 46 ویں اجلاس میں رکن ریاستوں نے قرارداد منظور کی تھی جس کے متن میں واضح کیا گیا تھا کہ ‘جموں و کشمیر دونوں ممالک پاکستان اور بھارت کے درمیان بنیادی تنازع ہے اور یہ قرارداد جنوبی ایشیا میں امن کے خواب کے لیے ناگزیر ہے’۔

او آئی سی کی قرارداد میں مقبوضہ کشمیر میں بھارت کے حالیہ دہشت گردانہ اقدامات کی سخت الفاظ میں مذمت کی گئی تھی اور مقبوضہ وادی میں مظالم اور انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں پرگہری تشویش کا اظہار کیا گیا تھا۔بھارت کی وزارت خارجہ سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ ‘مقبوضہ جموں و کشمیر کے حوالے سے قرارداد کے معاملے پر ہمارا موقف واضح اور ٹھوس ہے، ہم تجدید کرتے ہیں کہ جموں و کشمیر بھارت کا حصہ ہے اور یہ مکمل طور پر بھارت کا اندرونی معاملہ ہے’

کیا پاکستان میں پکڑا گیا بھارتی پائلٹ ابھینندن اب دوبارہ طیارہ اڑائے گا یا نہیں ؟ بھارتی فضائیہ کے سربراہ نے بتا دیا

نئی دہلی  بالاکوٹ میں بھارتی فضائیہ کے حملے سے متعلق سوال پر بھارتی ایئرفورس کے سربراہ بی ایس بھنوا گھبرا گئے اور کہا ہے کہ ہمارا کام مطلوبہ ہدف کو نشانہ بنانا تھا، ہلاکتوں کے بارے میں حکومت ہی بتائے گی ، ہم گنتی نہیں کرسکتے، ابھینندن سے متعلق ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ ابھینندن ابھی فٹ نہیں ہے ، ان کی دوبارہ پرواز میڈیکل سے مشروط ہے ۔

انڈین میڈیا کے مطابق پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے بھارتی ایئرچیف مارشل بی ایس بھنوا نے کہا ہے کہ رافیل جہاز ستمبر میں ایئرفورس کا حصہ بن جائیں گے ، ہمارا فرض ہدف کو نشانہ بناناتھا اور ہم نے بنایا، اگر نہیں بنایا تو پاکستان نے جوابی کارروائی کیوں کی ؟ ہم یہ گنتی نہیں کرسکتے کہ کتنے لوگ مرے ہیں، اس کا انحصار اس بات پر ہے کہ وہاں کتنے لوگ موجود تھے۔ ابھینندن کے دوبارہ پرواز بھرنے سے متعلق سوال کے جواب میں ایئرچیف نے کہا کہ ’’ ہم پائلٹ کی میڈیکل فٹنس پر کوئی چانس نہیں لیتے ، اگر ابھینندن فٹ ہوا تو وہ لڑاکا طیارہ اڑائے گا‘‘۔انہوں نے مزید کہاکہ ابھی نندن نے جہاز سے چھلانگ لگائی ہے ، جس سے جسم پر کافی دبائو پڑتاہے ، اگر کوئی  بھی شخص ایک مرتبہ  طیارے سے باہر  چھلانگ لگائے اور دوبارہ پھر ایسا ہی کرنا پڑجائے تو وہ شخص وہیل چیئرپر جاسکتاہے‘‘۔

بی ایس بھنوا کاکہناتھاکہ میں نے بھی طیارے سے ایجکٹ کیا ہوا ہے اور مجھے پتہ ہے ، لڑاکا طیارے کا پائلٹ ہونے کے لیے انتہائی تندرست ہونا چاہیے ، لڑاکا طیاروں کے پائلٹس کا انتخاب مشکل ہونے کی ایک وجہ یہ بھی ہے ۔

پاکستانی طیارے کے مقابلے کے لیے مگ 21 بھیجے جانے سے متعلق بات کرتے ہوئے ایئرچیف کا کہناتھاکہ پہلے سے منصوبے کے تحت آپریشنز میں آپ طیارے کے استعمال کی بھی منصوبہ بندی کرتے ہیں لیکن جب ایسی صورتحال ہوتو آپ اپنے پاس موجود ہر جہاز کو استعمال کرلیتے ہیں، یہ نہیں دیکھتے کہ یہ کونسا جہاز ہے ، تمام جہاز ہی لڑائی کے قابل ہیں۔

انڈین ایئرفورس چیف کا کہناتھاکہ میں سیاسی معاملات پر بات نہیں کرتا، ہم ابھینندن کی واپسی پر خوش ہیں۔

آپ نے کہاجھوٹ بولوں تواللہ کاقہرنازل ہو،شاید اللہ کاقہر نازل ہونے کاوقت آگیا،سپریم کورٹ کا جھوٹی گواہی دینے والے اے آئی ایس کیخلاف کارروائی کا حکم

اسلام آباد چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس آصف سعید کھوسہ نے قتل کیس میں جھوٹی گواہی دینے والے اے ایس آئی خضرحیات کو جھوٹا قراردیدیااور اے ایس آئی کیخلاف کارروائی کا حکم دیتے ہوئے معاملہ سیشن کورٹ نارووال کو ارسال کردیا۔

چیف جسٹس پاکستان نے ریمارکس دیئے ہیں آپ نے کہاجھوٹ بولوں تواللہ کاقہرنازل ہو،شاید اللہ کاقہر نازل ہونے کاوقت آگیا،آج 4 مارچ 2019 سے سچ کاسفرشروع کررہے ہیں تاکہ تمام گواہوں کوخبرہوجائے۔چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ نظام عدل کو تباہ کرنے والے لوگوں سے ہمیں کوئی ہمدردی نہیں ،اب جھوٹ نہیں چلے گا،انصاف چاہئے تو سچ بولناہوگا۔چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ ہم نے71 سال ضائع کردیئے ،کسی کو جھوٹ بولنے کالائسنس کیوں دیں ،جھوٹ چلتا رہے گا توانصاف نہیں ہوگا۔خضرحیات نے لاہور میں بیٹھ کر نارووال میں واقعہ دیکھ لیا۔چیف جسٹس پاکستان نے قرآنی آیات بھی پڑھ کر سنائیں حق آگیاباطل مٹ گیا،بے شک باطل مٹنے کیلئے ہے ۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں بنچ نے جھوٹی گواہی سے متعلق کیس کی سماعت کی،قتل کیس میں جھوٹی گواہی دینے کے الزام میں اے ایس آئی خضرحیات سپریم کورٹ میں پیش ہو گئے۔

دوران سماعت چیف جسٹس پاکستان نے اے ایس آئی سے استفسار کیا کہ آپ وحدت کالونی لاہورمیں کام کررہے تھے؟،آپ نے نارووال میں قتل کے مقدمے کی گواہی دےدی۔

چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ نے کہا کہ حلف پرجھوٹابیان دیناغلط ہے،اگرانسانوں کانہیں تواللہ کاخوف کرناچاہئے تھا،آپ نے کہاجھوٹ بولوں تواللہ کاقہرنازل ہو،شاید اللہ کاقہر نازل ہونے کاوقت آگیا۔

چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ پولیس ریکارڈ کے مطابق آپ چھٹی پر تھے،پولیس والے ہوکے آپ نے جھوٹ بولا،ہائیکورٹ نے بھی کہاکہ یہ جھوٹا ہے،

وکیل اے ایس آئی خضرحیات نے کہا کہ عیدکادن تھا،چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ عید کے دن جھوٹ بولنے کی اجازت ہوتی ہے؟تھانے میں کوئی ملنے والابھی آئے توریکارڈرکھاجاتاہے۔

چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ قانون کہتا ہے جھوٹی گواہی پرعمرقیدہوتی ہے،آج 4 مارچ 2019 سے سچ کاسفرشروع کررہے ہیں،تمام گواہوں کوخبرہوجائے۔

چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ بیان کاکچھ حصہ جھوٹ ہوا تو سارا بیان مستردہوگا،آج سے جھوٹی گواہی کاخاتمہ کررہے ہیں،اس جھوٹے گواہ سے آغازکررہے ہیں۔

سپریم کورٹ نے قتل کیس میں جھوٹی گواہی دینے والے اے ایس آئی خضرحیات کو جھوٹا قراردیدیااور اے ایس آئی کیخلاف کارروائی کا حکم دیتے ہوئے معاملہ سیشن کورٹ نارووال کو ارسال کردیا۔

چیف جسٹس پاکستان نے ریمارکس دیئے ہیں آپ نے کہاجھوٹ بولوں تواللہ کاقہرنازل ہو،شاید اللہ کاقہر نازل ہونے کاوقت آگیا،آج 4 مارچ 2019 سے سچ کاسفرشروع کررہے ہیں تاکہ تمام گواہوں کوخبرہوجائے۔چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ نظام عدل کو تباہ کرنے والے لوگوں سے ہمیں کوئی ہمدردی نہیں ،اب جھوٹ نہیں چلے گا،انصاف چاہئے تو سچ بولناہوگا۔چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ ہم نے71 سال ضائع کردیئے ،کسی کو جھوٹ بولنے کالائسنس کیوں دیں ،جھوٹ چلتا رہے گا توانصاف نہیں ہوگا۔خضرحیات نے لاہور میں بیٹھ کر نارووال میں واقعہ دیکھ لیا۔چیف جسٹس پاکستان نے قرآنی آیات بھی پڑھ کر سنائیں حق آگیاباطل مٹ گیا،بے شک باطل مٹنے کیلئے ہے ۔

آشیانہ و رمضان شوگرملز ریفرنس کی سماعت 16 مارچ تک ملتوی،آئندہ سماعت پر فرد جرم عائد کی جائیگی

لاہور احتساب عدالت نے آشیانہ اور رمضان شوگر ملز ریفرنس میں نامزد ملزمان کوریفرنس کی کاپیاں فراہم کردیں اور مقدمے کی سماعت 16مارچ تک ملتوی کردی،عدالت نے شہبازشریف،حمزہ شہبازاورگواہوں کو 16 مارچ کو دوبارہ طلب کر لیا،آئندہ سماعت پر فرد جرم عائد کی جائے گی۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت کے جج نجم الحسن نے رمضان شوگر ملز ریفرنس کی سماعت کی،ملزمان شہبازشریف اور حمزہ شہبازعدالت میں پیش ہوئے۔وکیل شہبازشریف نے کہا کہ شہبازشریف کی طبیعت ٹھیک نہیں،حاضری لگاکرجانے دیں،کیس میں سینئروکیل ہائیکورٹ میں مصروف ہیں،آج ریفرنس کی کاپیاں فراہم نہ کی جائیں۔

جج احتساب عدالت نے کہا کہ ریفرنس کی کاپیاں فراہم کر دیتے ہیں اس میں کیا مسئلہ ہے ،عدالت نے رمضان شوگر ملز ریفرنس کی کاپیاں شہبازشریف اور حمزہ شہبازکو فراہم کردیں۔

عدالت نے ریمارکس دیئے کہ آج کی عدالتی کارروائی رکے گی نہیں گواہوں کے بیانات قلمبند ہوں گے ۔نائب صدرہائیکورٹ بار نے کہا کہ آپ ہماراوقت ضائع کررہے ہیں،جج احتساب عدالت نے کہا کہ میں عدالت کی کارروائی کررہاہوں وقت ضائع نہیں کر رہاہوں ۔

شہبازشریف نے کہا کہ میری کمر میں درد ہے مجھے جانے دیں ،جج نجم الحسن نے کہا کہ شہبازشریف کو کرسی دے دیں اس پر بیٹھ جائیں ۔

عدالت نے آشیانہ اوررمضان شوگرملز کیس کی سماعت16 مارچ تک ملتوی کردی ،عدالت نے شہبازشریف ،حمزہ شہباز اور گواہوں کو16 مارچ کو دوبارہ طلب کر لیا،ملزموں پرآئندہ سماعت پر فرد جرم عائد کی جائے گی۔

پاک فضائیہ کے سربراہ مجاہد انور خان نے پیغام جاری کر دیا

اسلام آباد  ایئر چیف مارشل مجاہد انور خان نے فارورڈ آپریشنل ایئر بیسز کا دورہ کیا اور اس دوران انہوں نے پیغام جاری کرتے ہوئے کہا کہ پوری قوم پا ک فضائیہ پر نازاں ہے ،اللہ کا شکر ہے جس نے ہمیں طاقت دی کہ ہم قوم کی امیدوں پر پورا اتر سکیں ۔

تفصیلات کے مطابق ایئر چیف مجاہد انور خان نے پاک فضائیہ کے جوانوں کو ہدایت جاری کرتے ہوئے کہا کہ مشکل وقت ابھی ختم نہیں ہوا ، دشمن کی جارحیت کا بھر پور جواب دینے کیلئے ہمہ وقت تیار رہنا ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ خدا کے سامنے سربسجود ہیں اور اس کا شکرادا کرتے ہیں کہ ہمیں طاقت دی کہ ہم قوم کی امیدوں پر پورا اترسکیں ۔ انہوں نے کہا کہ ملکی سالمیت اور دفاع کا فریضہ احسن انجام دینے پر قوم کو ناز ہے ۔

یاد رہے کہ پاک فضائیہ نے کنٹرول لائن کی خلاف ورزی کرنے والے دو بھارتی طیاروں کو مار گرایا جس میں سے ایک کا ملبہ مقبوضہ کشمیر اور دوسرے کا پاکستان میں گرا جبکہ بھارتی فضائیہ کے ایک پائلٹ کو بھی گرفتار کیا گیا جسے وزیراعظم عمران خان نے جذبہ خیر سگالی و امن کے قیام کیلئے رہا کرنے کا اعلان کیا جس پر عملدرآمد بھی کر دیا گیا ہے

گستاخانہ خاکے: ہالینڈ سے سفارتی تعلقات منقطع کرنے کی درخواست پر فیصلہ سنادیا گیا

اسلام آباد عدالت عالیہ نے گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کے معاملے پر دائر کردہ درخواست پر محفوظ فیصلہ سنادیا، مقدمے میں ہالینڈ سے سفارتی تعلقات منقطع کرنے کی درخواست کی گئی تھی۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس محسن اختر کیانی پر مشتمل یک رکنی بنچ نے شہر ی حافظ احتشام کی جانب سے دائر کردہ درخواست پر سنایا ہے ، فیصلہ 26 فروری کو محفوظ کیا گیا تھا۔

عدالت نے درخواست نمٹاتے ہوئے اپنے فیصلے میں پاکستان ٹیلی کمیونی کیشن اتھارٹی ( پی ٹی اے) کو ہدایت کی کہ اس معاملے پر ہائی کورٹ کے احکامات کی روشنی میں عمل درآمد یقینی بنایا جائے۔

اسلام آباد ہائی کورٹ میں یہ درخواست پاکستانی شہری حافظ احتشام احمد کی جانب سے دائر کی گئی تھی ، پٹیشن میں وزیراعظم کے پرنسپل سیکرٹری، سیکرٹری خارجہ، سیکرٹری داخلہ اور سیکرٹری آئی ٹی کوفریق بنایا گیا ہے۔

درخواست میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ اہل ایمان کیلئے سب سے قیمتی اثاثہ آقا صلی اللہ علیہ وسلم سے رشتہ ہے اور کوئی بھی مسلمان ناموسِ رسالت کے تحفظ کیلئے کسی بھی حد تک جاسکتا ہے۔

یاد رہے کہ ہالینڈ کے گیرٹ ولڈرز نامی شہری نے گزشتہ سال گستاخانہ خاکے بنانے کا مقابلہ منعقد کرانے کا اعلان کیا تھا ، تاہم دنیا بھر کے مسلمانوں کے احتجاج اور غم و غصے کو مدنظر رکھتے ہوئے یہ مقابلہ منسوخ کردیا گیا تھا۔گزشتہ سماعت میں جسٹس محسن کیانی نے اپنے ریمارکس میں کہا تھا کہ حضور کی عزت و ناموس کا معاملہ اہم ہے۔ اس حساس معاملے پر فیصلہ جلد جاری کیا جائے گا

پولینڈ ہاکی ٹیم کی اگلے ماہ پاکستان آنے کی تصدیق

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)پولینڈ ہاکی ٹیم نے اگلے ماہ دورہ پاکستان کی تصدیق کردی ہے۔

مہمان ٹیم 15 اپریل سے 24 اپریل تک لاہور یا کراچی میں میچز کھیلے گی، پاکستان ہاکی فیڈریشن نے میچز کے مقامات ، انتظامات اور ٹیموں کے انتخاب کیلئے مشاورت شروع کردی ہے۔

ذرائع کے مطابق 9 روزہ دورے پر پولش ٹیم کے ساتھ 5 سے 6 میچز ممکن بنانے کی کوشش کی جارہی ہے، اس کیلئے سینئر ٹیم کے ساتھ ڈویلپمنٹ سکواڈ کو بھی میدان میں اتارنے کی پلاننگ ہورہی ہے تاکہ نوجوانوں کو آگے آنے کا زیادہ سے زیادہ موقع دیا جاسکے۔

عالمی درجہ بندی میں 21ویں نمبر پر موجود ٹیم کے اس دورے کا مقصد انڈیا میں شیڈول ہاکی اوپن سیریزکیلئے تیاری ہے ،پولینڈ کی ٹیم پاکستان کا دورہ مکمل کرکے دہلی کی اڑان بھرے گی۔

Google Analytics Alternative