- الإعلانات -

کشمیر بنے گا پاکستان

بھارتی فوج کی جانب سے مظلوم کشمیریوں پر مسلسل اور بدترین مظالم کے خلاف ملک بھر میں یوم یک جہتی کشمیر، کشمیر بنے گا پاکستان کے عہد کی تجدیدکے ساتھ منایا گیا ۔ کشمیری شہدا کو خراج عقیدت پیش کرنے کےلئے صبح 10 بجے ملک بھر میں ایک منٹ کی خاموشی اختیار کی گئی ۔ اظہاریکجہتی کےلئے ریلیاں ، جلوس نکالے گئے اور مختلف تقریبات منعقد کی گئیں ۔ بیرون ملک کشمیریوں ، پاکستانیوں اور دیگر اقوام نے مظلوم کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لئے یوم یکجہتی کشمیراس عزم کے ساتھ منایا کہ اس کا مقصد مقبوضہ کشمیر کے عوام کو حق خود ارادیت اور بھارتی مظالم کے خاتمے کے لیے آواز اٹھانا ہے ۔ یوم یکجہتی کشمیر صرف پاکستان، آزادکشمیر ہی نہیں بلکہ یورپ اور دیگر ممالک میں بھی بھرپور جوش و خروش سے منایا گیا ۔ نیویارک میں بھارتی سفارتخانے کے باہر ٹیکسیوں کی ریلی نکالی گئی ۔ ٹیکسیوں کے قافلے نے مین ہیٹن سمیت مختلف علاقوں میں گشت کیا ۔ قافلے نے اقوام متحدہ کے دفتر کے سامنے بھی چکر لگائے ۔ برسلز میں کشمیر کونسل ای یو نے بھی یورپی پارلیمنٹ کے سامنے شدید بارش میں کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیا ۔ یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے اپنے پیغام میں کشمیری بھائیوں اور بہنوں کےلئے پاکستان کی حمایت کا اعادہ کیا ۔ وزیر اعظم پاکستان عمران خان نے یوم یک جہتی کشمیر کے موقع پر دورہ آزاد کشمیر کے موقع پر قانون ساز اسمبلی کے اجلاس سے خطاب کر تے ہوئے کہا کہ 5 اگست 2019ء کا مقبوضہ کشمیر کے حوالہ سے مودی سرکار کا اقدام کشمیریوں کی آزادی کا سبب بنے گا ۔ حکومت پاکستان تنازعہ کشمیر حل ہونے تک کشمیریوں کی بھرپور انداز میں سیاسی، اخلاقی، سفارتی حمایت جاری رکھے گی ۔ ہم دنیا کے ہر فورم پر مقدمہ کشمیر لڑنے کے ساتھ بھارتی حکومت اور ان کے آر ایس ایس کے فلسفہ کو بے نقاب کر تے رہیں گے ۔ حکومت پاکستان میڈیا، سیاسی وسفارتی محاذ پر مسئلہ کشمیر کے حوالہ سے اپنا موثر کردار ادا کرے گی ۔ کشمیری قیادت کی تجاویز کا خیر مقدم کریں گے ۔ بھارت نے 9 لاکھ فوج کی تعیناتی کے ذریعے 80 لاکھ کشمیریوں کو اپنی ہی سرزمین پر قیدیوں میں تبدیل کردیا ہے ۔ بھارت دنیا کے سامنے انتہا پسند ہندوانہ بالادستی پر عملدرآمد کرنے والے ملک کے طور پر بے نقاب ہوگیا ہے ۔ وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی نے یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر اپنے پیغام میں کہا کہ عالمی برادری کو آزمائش اور تکالیف کی اس گھڑی میں مقبوضہ جموں وکشمیر کے عوام کی حمایت کےلئے مزید کردار ادا کرنا چاہیے ۔ پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر نے یوم یکجہتی کشمیر کے حوالے سے خصوصی نغمہ بھی جاری کیا ۔ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر کہنا تھا کہ کشمیریوں کے لیے ہماری غیر متزلزل حمایت جاری رہے گی ۔ پائیدار امن ابھی تک ایک خواہش سے زیادہ کچھ نہیں ہے ۔ ہر قسم کی جارحیت کا مقابلہ کرنے کی صلاحیت اور استعداد رکھتے ہیں لیکن امن کی خواہش اور بھارت کے ہاتھوں کشمیریوں کے نقصانات کے مدنظر صبر و تحمل کا مظاہرہ کر رہے ہیں ۔ اِس سال 5 فروری یکجہتی کے اظہار سے بڑھ کر ہے اورہم اپنے کشمیری بھائیوں اور بہنوں کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں کہ وہ ثابت قدمی سے بھارتی جبر و استبداد کا مقابلہ کر رہے ہیں ۔ کراچی شاہراہ فیصل پر یوم یکجہتی کشمیر ریلی سے خطاب کرتے ہوئے امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے مطالبہ کیا کہ کشمیر کی آزادی کےلئے اب عملی اقدامات کریں ۔ پاکستان کی فوج پاکستان کےلئے ہے ۔ قوم کا مطالبہ ہے کہ وہ کشمیریوں کے لیے آگے بڑھے ۔ پور ی قوم ان کی پشت پر کھڑی ہوگی ۔ مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے او آئی سی کا اجلاس اسلام آباد یا مظفر آباد میں بلایا جائے ۔ اقوام متحدہ اپنی قراردادوں کے مطابق کشمیریوں کے استصواب رائے کا حق دلوائے ۔ اہل کشمیر اور پوری کشمیری قیادت خراج تحسین کی مستحق ہے جو بدترین ریاستی جبر و تشدد کے باوجود آزادی کی جدوجہد میں مصروف ہے ۔ حقیقت یہ ہے کہ اس وقت دنیا میں سب سے زیادہ مظلوم کشمیری قوم ہے ۔ 185 دن گزرنے کے بعد بھی کشمیری عوا م کے ساتھ ہونیوالے مظالم میں کمی نہیں آئی ۔ کشمیریوں کو بھارتی مسلح افواج کی جانب سے محصوررکھنا انسانی حقوق کی بد ترین خلاف ورزی ہے اور اس پر عالمی برادری کی بے حسی ایک بہت بڑا المیہ ہے ۔ کشمیری عوام عالم اسلام سمیت اقوا م متحدہ کی طرف دیکھ رہے ہیں ۔ افسوس کہ ;8578;نے کروڑوں کشمیریوں پر ظلم و ستم اور بربریت کے باوجود اپنا رول ادا نہیں کیا 73 گزرنے کے باوجود کشمیریوں کے حق خود ارادیت کیلئے منظور کردہ قرار دادوں پر عمل درآمد نہ کرانا ;8578;کی ناکامی ہے ۔ پاکستان بطور ریاست اور ہر پاکستانی کشمیریوں کی جدوجہد آزادی کی حمایت کرتا ہے ۔ آج کے دن اہل پاکستان اور دنیا کے انصاف پسند طبقات بھارت کی مذمت کرتے ہوئے اقوام متحدہ اور عالمی طاقتوں سے مطالبہ کرتے ہیں کہ کشمیر پر بھارتی جبر کا خاتمہ کیا جائے اور کشمیریوں کو اپنی مرضی سے جینے کا حق دیا جائے ۔ بھارتی جارحیت کا مقصد کشمیریوں کے حقوق کو غصب کرنا اور طاقت کے استعمال سے دبانا ہے ۔ وادی کو جیل میں تبدیل کرتے ہوئے لاکھوں کشمیریوں کو قید کیا گیا ۔ کشمیری، مرد، خواتین، بوڑھے، بچے اور بیمار، اقوام متحدہ کی قراردادوں کی روشنی میں اپنا حق خود ارادیت حاصل کرنے کےلئے جدوجہد کر رہے ہیں ۔ ہم بحیثیت مسلمان اور پاکستانی کشمیریوں کو بتانا چاہتے ہیں کہ اس جدو جہد میں وہ اکیلے نہیں ہیں ۔ ہم کشمیریوں کی تکالیف اور بہتر کل کے خوابوں میں ان کے ساتھ کھڑے ہیں ۔ ہم دنیا کے ضمیر کو جھنجھوڑنے میں اپنا کردار ادا کر تے رہیں گے اور کشمیریوں کےلئے ہماری غیر متزلزل حمایت جاری رہے گی ۔