- الإعلانات -

برطانوی وزیر اعظم بورس جانسن کی طبیعت بگڑ گئی، آئی سی یو منتقل کردیا گیا

کورونا وائرس کا نشانہ بننے والے برطانوی وزیر اعظم بورس جانسن کو انتہائی نگہداشت کے وارڈ منتقل کردیا گیا ہے۔ انہیں پیر کو ہی طبیعت خراب ہونے پر ہسپتال منتقل کیا گیا تھا تاہم اب ان کی حالت زیادہ خراب ہونے کی وجہ سے انہیں آئی سی یو میں شفٹ کرنا پڑ گیاہے۔ برطانیہ کے وزیراعظم ہاؤس 10 ڈاؤننگ سٹریٹ کی جانب سے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ پیر کی دوپہر کو وزیر اعظم بورس جانسن کی طبیعت زیادہ خراب ہوگئی تھی جس کے بعد ان کی میڈیکل ٹیم سے مشاورت کی گئی اور انہیں ہسپتال کے آئی سی یو منتقل کردیا گیا۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ وزیر اعظم نے برطانوی وزیر خارجہ ڈومنک راب سے کہا ہے کہ وہ جہاں ضرورت ہو حکومتی معاملات کو دیکھیں۔ ” وزیر اعظم کی شاندار طریقے سے دیکھ بھال کی جارہی ہے، نیشنل ہیلتھ سروسز کے سٹاف کا شکریہ جو انتہائی جانفشانی سے کام کر رہا ہے۔”

برطانوی اخبار ٹیلی گراف کے مطابق وزیر اعظم بورس جانسن کو احتیاطی تدبیر کے طور پر آئی سی یو منتقل کیا گیا ہے تاکہ اگر انہیں وینٹی لیٹر کی ضرورت پیش آئے تو فوری طور پر فراہم کیا جاسکے۔

برطانوی وزیر اعظم ہاؤس نے پہلا بیان جاری کرنے کے تھوڑی ہی دیر بعد ایک اور بیان جاری کیا ہے اور کہا ہے کہ  وزیر اعظم بورس جانسن اب تک مکمل ہوش و حواس میں ہیں۔

انہیں برطانوی وقت کے مطابق شام 7 بجے (رات 11 بجے پاکستانی وقت) آئی سی یو منتقل کیا گیا ۔ وزیر خارجہ ڈومنک راب نے کہا ہے کہ اب بھی حکومت کے انچارج بورس جانسن ہی ہیں۔