پاکستان معیشت و تجارت

ملک بھر میں مہنگائی کی شرح کم ہو کر 40.58 فیصد تک پہنچ گئی

مہنگائی

ملک بھر میں مہنگائی کی شرح کم ہو کر 40.58 فیصد تک پہنچ گئی۔تفصیلات کے مطابق وفاقی ادارہ شماریات کی جانب سے جاری میں ہفتہ وار مہنگائی کی رپورٹ کے مطابق حالیہ ہفتے مہنگائی کی مجموعی شرح میں 0.19 فیصد کمی ریکارڈ کی گئی اور شرح 40.58 فیصد رہی، حالیہ ہفتے 30 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ ہوا اور 10 اشیا کی قیمتوں میں کمی واقع ہوئی جبکہ 11 اشیا کی قیمتیں مستحکم رہیں۔رپورٹ کے مطابق آلو کی قیمتوں میں0.33 فیصد، پیاز کی قیمتوں میں 16.24 فیصد، ٹماٹر کی قیمتوں میں 9.84 فیصد، چکن کی قیمتوں میں 1.88 فیصد، چینی کی قیمتوں میں 0.95 فیصد، ویجی ٹیبل گھی کی قیمتوں میں 0.39 فیصد، کوکنگ آئل کی قیمتوں میں 0.10 فیصد جبکہ ایل پی جی کی قیمتوں میں 2.62 فیصد کمی واقع ہوئی۔ادارہ شماریات کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ چائے کی پتی کی قیمتوں میں 6.30 فیصد اضافہ ہوا، دال مونگ کی قیمتوں میں 3.46 فیصد، انڈوں کی قیمتوں میں 2.54 فیصد، دال چنا کی قیمتوں میں 2.53 فیصد، آٹا کی قیمتوں میں 1.96 فیصد، چاول کی قیمتوں میں 1.73 فیصد، دال ماش کی قیمتوں میں 1.68 فیصد اور بریڈ کی قیمتوں میں 1.45 فیصد اضافہ ہوا ہے، حالیہ ہفتے 11 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں استحکام رہا۔ گزشتہ ہفتے کے دوران حساس قیمتوں کے اعشاریہ کے لحاظ سے سالانہ بنیادوں پر 17 ہزار 732 روپے ماہانہ تک آمدنی رکھنے والے طبقے کیلئے مہنگائی کی شرح میں 33.03 فیصد، 17 ہزار 733 روپے سے 22 ہزار 888 روپے ماہانہ تک آمدنی رکھنے والے طبقے کیلئے مہنگائی کی شرح میں 38.29 فیصد اضافہ ہوا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔