Home » Author Archives: Admin

Author Archives: Admin

قطر کا پاکستان میں 3 ارب ڈالرز کی سرمایہ کاری کا اعلان

دوحہ: قطر کی حکومت نے پاکستان میں 3 ارب ڈالرز کی سرمایہ کاری کا اعلان کردیا۔

امیر قطر شیخ تمیم بن حمد الثانی کے دورہ پاکستان کے ثمرات نظر آنے لگے۔ قطر کی سرکاری نیوز ایجنسی کے مطابق قطر کی حکومت پاکستان میں براہ راست سرمایہ کاری اور ڈپوزٹس کی صورت میں 3 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کرے گی۔ نئی سرمایہ کاری کے بعد قطر کی پاکستان میں سرمایہ کاری 9 ارب ڈالرز تک پہنچ جائے گی۔

مشیر خزانہ حفیظ شیخ نے نئی قطری سرمایہ کاری کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا ہے کہ شیخ تمیم بن حماد الثانی نے پاکستانی خزانے میں جمع کروانے اور سرمایہ کاری کیلئے تین ارب ڈالرکا اعلان کیا ہے، اس پر امیر قطر کا شکریہ ادا کرتا ہوں، دونوں ممالک کے تعلقات مزید بہتر کرنے کی یقین دہانی پر بھی امیر قطر کے شکرگزار ہیں۔

امیر قطر شیخ تمیم بن حمد الثانی نے ہفتہ اور اتوار کو پاکستان کا دو روزہ دورہ کیا ہے جس کے دوران دونوں ممالک کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون کے لیے مفاہمت کی یادداشتوں پر دستخط کئے گئے۔

وزیراعظم کی انا کے باعث قومی اسمبلی میں لفظ ’سلیکٹڈ‘ پر پابندی لگائی گئی، بلاول

 اسلام آباد: پاکستان پیپلز پارٹی کے چیرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ وزیراعظم کی انا کے باعث قومی اسمبلی میں لفظ ’سلیکٹڈ‘ پر پابندی لگائی گئی۔

قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ وزرا کے غیر سنجیدہ رویے پر قوم سے معافی مانگتا ہوں۔ بلاول نے پشتون تحفظ موومنٹ (پی ٹی ایم) کے رکن قومی اسمبلی محسن داوڑ اور علی وزیر کے پروڈکشن آرڈر جاری کرنے کا مطالبہ دہرایا۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کے اقدامات کی وجہ سے ملک جل رہا ہے، ان کا ہر فیصلہ غلط ثابت ہوتا ہے، سیاست، معیشت اور حکومت سمیت وزیراعظم جس کام کو ہاتھ لگاتے ہیں وہ خراب ہوجاتا ہے، ان کا ہر فیصلہ ایسا ہے جیسے آگ پر تیل چھڑک رہے ہوں، حکومت دوغلی پالیسی بند کرکے اپنا بجٹ واپس لے، حکومت نے آئی ایم ایف کے سامنے گھٹنے ٹیک دیے ہیں۔

بلاول بھٹو زرداری نے قومی اسمبلی میں لفظ سلیکٹڈ پر پابندی پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ایک سال پہلے میری تقریر میں جس لفظ پر وزیراعظم نے ڈیسک بجائے آج وہی لفظ ممنوع قرار دے دیا گیا ہے، ملک میں عوام، صحافت اور سیاست کچھ بھی آزاد نہیں، سلیکٹڈ کوئی غیر پارلیمانی لفظ نہیں لیکن وزیراعظم کی انا کی وجہ سے یہ پابندی لگائی گئی اور تاریخی سنسر شپ کی جارہی ہے، یہ کیسی آزادی ہےکہ ممبران اسمبلی کےالفاظ حذف کیےجاتےہیں، نیا پاکستان سنسرڈ پاکستان ہے جو نامنظور ہے، حکومت آگ پر مزید تیل چھڑک رہی ہے، اپوزیشن کی آواز کو دبانے سے غصہ کہیں اور نکلے گا۔

آل پارٹیز کانفرنس 26 جون کو اسلام آباد میں ہوگی، مولانا فضل الرحمان

اسلام آباد: جمعیت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے اعلان کیا ہے کہ آل پارٹیز کانفرنس (اے پی سی) کا اجلاس 26 جون کو اسلام آباد میں ہوگا۔

اسلام آباد میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے جے یو آئی کے سربراہ مولانا فضل الرحمان آل پارٹیز کانفرنس کے اجلاس کا حتمی اعلان کرتے ہوئے بتایا ہے کہ اے پی سی کا اجلاس 26 جون کو اسلام آباد میں ہوگا جس میں تمام سیاسی جماعتی شرکت کریں گی اور اجلاس کا اعلامیہ بھی جاری کیا جائے گا۔

مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ اے پی سی اجلاس کے حوالے سے تمام جماعتوں سے مشاورت جاری ہے، جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق سے بھی ایک گھنٹہ ملاقات ہوئی اور انہوں نے کسی قسم کی ناراضی کا اظہار نہیں کیا۔ اے پی سی کے فورم میں جو فیصلے ہوں گے اجلاس کے کے بعد تبصرہ ہوگا۔

پاکستان کی سعودی ایئر پورٹ پر حملے کی شدید الفاظ میں مذمت

اسلام آباد: پاکستان نے سعودی عرب کے ابھاکے ایئرپورٹ پر حوثی باغیوں کی جانب سے حملے کی شدید مذمت کی ہے۔

غیرملکی خبر ایجنسی کے مطابق سعودی عرب کے جنوب مغربی علاقے کے شہر ابھا کے ایئرپورٹ پر حوثی باغیوں کی جانب سے رواں ماہ دوسرا حملہ کیا گیا ہے، جس میں ایک شامی باشندہ جاں بحق اور مختلف ممالک سے تعلق رکھنے والے 21 افراد زخمی ہوئے۔

پاکستان نے سعودی ایئرپورٹ پر حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے، دفترخارجہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ ایئر پورٹ پر حملے میں ایک شخص جاں بحق اور 21 زخمی ہوئے، پاکستان اس حملے کی شدید الفاظ میں مذمت اور بردار ملک سعودی عرب کی سلامتی اور علاقائی سالمیت کو درپیش خطرے میں یکجہتی اور حمایت کا اعادہ کرتا ہے۔

امیر قطر کا دورہ پاکستان، بھاری سرمایہ کاری ،پاکستانی معیشت کیلئے سود مند

امیر قطر دو دن کا دورہ مکمل کرنے کے بعد واپس چلے گئے، ان کے دورے کے دوران جو معاہدے ہوئے اس کے تحت نوجوانوں اور ہنر مند پاکستانیوں کیلئے قطر کے دروازے کھلیں گے ۔ دوطرفہ تجارت کو فروغ ملے گا، موجودہ صورتحال میں دونوں ممالک کے درمیان اس قسم کے معاہدے ہونا انتہائی ضروری تھے ۔ جب قطر میں پاکستانیوں کیلئے روزگار کے مواقع کھلیں گے تو یقینی طورپر اس کے بدلے میں پاکستان میں زر مبادلہ آئے گا، معاشی صورتحال بہتر ہوگی، دونوں ممالک کے مابین مختلف شعبوں میں تعاون کیلئے مفاہمت کی یادداشت پر دستخط کیے گئے، امیر قطر شیخ تمیم بن حمد الثانی کے دورہ پاکستان کے دوران پاکستان اور قطر کے درمیان شراکت داری کو مزید مضبوط کرنے کا عزم بھی دہرایا گیا ۔ امیر قطر کو صدر مملکت عارف علوی نے ایوان صدر میں منعقدہ پروقار تقریب کے دوران اعلی ٰ ترین سول ایوارڈ ’’ نشان پاکستان ‘‘ سے بھی نوازا ۔ یہ ایوارڈ شیخ تمیم بن حمد الثانی کو باہمی تعلقات کو مزید بلندیوں پر لے جانے کے اعتراف میں حکومت پاکستان کی جانب سے عطا کیا گیا ۔ وزیراعظم اور امیر قطر کے مابین ون ٹو ون اور وفود کی سطح پر بھی ملاقات ہوئی ۔ ملاقات کے بعد اعلامیہ جاری کیا گیا جس کے تحت پاکستان اور قطر نے مضبوط سیاسی و اقتصادی شراکت داری کے فروغ کا عزم کرنے کے علاوہ دوطرفہ تجارت، زراعت اور خوراک کے شعبے میں تعاون بڑھانے پر اتفاق کیا ۔ ایل این جی اور ایل پی جی کے شعبے میں تعاون پر بھی اتفاق کیا گیا ۔ مذاکرات میں توانائی اور سیاحت کے شعبے میں سرمایہ کاری، قطر میں پاکستانیوں کے لئے روزگار کے مواقع بڑھانے پر بھی بات چیت ہوئی ۔ اعلامیے کے مطابق ہوا بازی، سمندری امور، اعلیٰ تعلیم اور دفاعی امور میں تعاون بڑھانے پر بھی گفتگو کی گئی ۔ دونوں ممالک کے مابین پہلا ایم او یو تجارت اور سیاحت اور مشترکہ ورکنگ گروپس کی تشکیل سے متعلق کیا گیا ۔ نیز منی لانڈرنگ اور دہشت گردی کی مالی معاونت روکنے کیلئے خفیہ معلومات کے تبادلے پر بھی اتفاق کیا گیا ۔ قبل ازیں وزیراعظم عمران خان سے ملاقات کے دوران شیخ تمیم نے قطر کی فٹ بال ٹیم کی شرٹ کا تحفہ دیا اور وزیراعظم نے انہیں اپنے دستخط والا بیٹ دیا ۔ اعلامیہ میں بتایا گیا کہ فیفا ورلڈ کپ قطر کو اپنی برآمدات پاکستان کیلئے بڑھانے کا نادر موقع فراہم کرے گا جبکہ پاکستان کی فٹ بال سازی کو بھی فروغ دیا جائے گا ۔ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کے دوران سعودی عرب کے بعد قطر کے امیر کا یہ دورہ سرمایہ کاری کے حوالے سے انتہائی اہمیت کا حامل ہے اس سے پاکستان کو درپیش معاشی مشکل صورتحال سے نکلنے میں مدد ملے گی ۔ دونو ں ممالک کے درمیان سیاسی و اقتصادی کی شراکت داری کے مزید فروغ کیلئے تعاون بڑھانے کے عزم کا اظہار کیا ۔ قائدین میں جن تجاویز پر اتفاق ہوا ہے انہیں ٹھوس اور عملی شکل دینے کیلئے متعلقہ وزراء اپنے متعلقہ شعبوں میں مذاکرات کے عمل کوآگے بڑھائیں گے ۔ وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات ونشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ امیر قطر شیخ تمیم بن حمد الثانی کے دورہ پاکستان سے دونوں ممالک کے درمیان مختلف شعبوں میں بھائی چارے پر مبنی تعلقات کو مزید فروغ دینے میں مدد ملے گی ۔

وزیراعظم کو سلیکٹڈ کہنے پر پابندی

قومی اسمبلی کے اجلاس میں حکومت اوراپوزیشن کے مابین ابھی تک پنجہ آزمائی ہورہی ہے ۔ گزشتہ روز اس وقت ڈپٹی سپیکر انتہائی غصے میں نظر آئے جب اپوزیشن کی جانب سے وزیراعظم کو سلیکٹڈ کہا گیا انہوں نے اس پرباقاعدہ رولنگ دیدی کہ یہاں جو ممبر آتا ہے وہ ووٹ لیکر آتا ہے لہذا اس قسم کے الفاظ استعمال نہ کیے جائیں ۔ ڈپٹی سپیکر کی یہ بات بالکل درست ہے ہم تو یہ کہتے ہیں کہ ابھی تک جو ہنگامہ آرائی ہورہی ہے اس کو حل کرنے کیلئے بھی باقاعدہ رولنگ صادر فرما دی جائے تاکہ کم ازکم ایوان میں سکون تو آسکے ۔ قومی اسمبلی کے ڈپٹی اسپیکر قاسم سوری نے ایوان میں وزیراعظم عمران خان کے لیے سلیکٹڈ کا لفظ استعمال کرنے پر پابندی عائد کردی ۔ ڈپٹی اسپیکر نے وفاقی وزیر توانائی عمرایوب کی تحریک استحقاق پر رولنگ دیتے ہوئے کہاکہ جو بھی اس ہاوس کا ممبر ہے وہ ووٹ لے کر آیا ہے انہوں نے ہدایت کی کہ آئندہ کوئی بھی یہ لفظ ایوان میں استعمال نہ کرے ۔ ن لیگ کے احسن اقبال نے کہاکہ بجٹ آئی ایم ایف کی خوشنودی حاصل کرنے کیلئے بنایا گیا جس کا غریب آدمی سے کوئی تعلق نہیں ، اپنے5سال میں 10ہزار ارب قرضے کا حساب دینے کیلئے تیار ہیں حکومت بتائے انہوں نے ایک سال میں 5 ہزار ارب کا قرض لے کر کہاں لگایابھینسیں اور گاڑیاں بیچ کر سادگی کا ڈرامہ رچایا گیا، ہماری پگڑیاں اچھالی گئیں تو ملکی کی گلی محلے میں آپکی پگڑیاں اچھالیں گے وفاقی وزیر خسروبختیار کا کہنا تھاکہ ن لیگ کے دور میں ملک کی معیشت میں 12 کھرب اور قرضوں کی مد 13 کھرب کا اضافہ ہوا،ایک کھرب کہاں گیادنیا ترقی کر رہی تھی ،(ن)لیگ کی ساری توجہ صرف موٹرویز پر تھی،ملک کو میثاق معیشت کی ضرورت ہے حکومت اپنے مالیاتی اہداف ضرور حاصل کرےگی خسارہ کم کرنے کیلئے عالمی اداروں کے پاس جانا پڑا ۔ پیپلز پارٹی کے راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ حکومت کے کسی وزیر یا رکن نے بجٹ کے خدوخال پر بات نہیں کی بار بار پچھلی حکومتوں پر تنقید کا سہارہ لے کر کچھ نہ کرنے کا جواز پیش کیا جا رہا ہے ۔ حکومت تنقید ضرور کرے لیکن تضحیک نہ کرے آج حالات بہت خوفناک ہیں حکومت نے ہر طبقہ میں خوف پیداکردیا ہے ، احتساب ضرورکریں مگر کاروباری لوگوں ، انڈسٹری کا اعتماد بحال کریں ۔ وفاقی وزیر ترقی و منصوبہ بندی خسرو بختیار نے کہا کہ ملک کو اس وقت میثاق معیشت کی ضرورت ہے ، پاکستان کا جی ڈی پی ٹیکس ریشو 11فیصد ہے جو خطے میں سب سے کم ہے،ان حالات میں کوئی بھی ملک ترقی نہیں کر سکتا ، یہ ملک بغیر ٹیکس کے چل ہی نہیں سکتا ، حکومت کا پانچ سال میں جی ڈی پی ٹو ٹیکس ریشو 15فیصد کا ہدف ہے ، پانچ سال کے اندر ایک کروڑ نوکریاں دیں گے ۔

کرکٹ ورلڈ کپ میں پاکستانی ٹیم کی واپسی

پاکستان نے ورلڈ کپ کے ایک اہم میچ میں جنوبی افریقہ کو شکست دیدی جس کے بعد اب پاکستان کے ورلڈ کپ میں سیمی فائنل میں پہنچنے کے امکانات روشن ہوگئے ہیں ۔ تاہم پاکستان کو اگلے میچوں میں نیوزی لینڈ اور بنگلہ دیش کو شکست دینا ضروری ہوگیا ہے ۔ پاکستان کرکٹ ٹیم کی ورلڈ کپ میں مجموعی پرفارمنس اتنی خاص نہیں تاہم آنے والے میچوں میں ٹیم کو فیلڈنگ پر خصوصی توجہ دینا ہوگی ۔ جنوبی افریقہ کے میچ میں بھی پاکستان نے یقینی کیچز ڈراپ کیے گو کہ پاکستان میچ جیت گیا جس کے بعد ان غلطیوں کو فراموش کردیا گیا ۔ اگرپاکستان نے بقیہ میچز میں اعلیٰ فیلڈنگ کا مظاہرہ کیا تو کوئی وجہ نہیں کہ قومی ٹیم ورلڈ کپ کے سیمی فائنل میں مرحلے میں پہنچنے کے بعد فائنل میں بھی رسائی حاصل کرسکے ۔ پاکستان اور جنوبی افریقہ کے میچ کو دیکھنے کیلئے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ اور آئی ایس پی آر کے ترجمان بھی لارڈز کرکٹ اسٹیڈیم میں موجود تھے جہاں پاکستان نے تاریخی کامیابی حاصل کی، آرمی چیف نے کھلاڑیوں کو مبارکباد بھی دی ۔

سلمان خان کی نئی تصویردیکھ کرمداح حیران پریشان

 ممبئی: بالی ووڈ کے دبنگ سلمان خان کی سوشل میڈیا پر جاری کی جانے والی نئی تصویر نے ان کے مداحوں کو حیران کردیا ہے۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بالی ووڈ کے دبنگ سلمان خان نے انسٹاگرام پراپنی ایک نئی تصویرجاری کی ہے، جسے دیکھ کر سب ہی حیران ہوگئے ہیں۔

بالی ووڈ میں ایک لمبا وقت گزارنے کے باوجود بھی سلمان خان دیگراداکاروں کے مقابلے میں بہت فٹ تصور کیے جاتے ہیں جس کا ثبوت انہوں نے خود اپنی اس تصویر کے ذریعے دے دیا جب کہ ان کے مداح بھی داد دیئے بنا نہیں رہ پارہے ہیں۔

دوسری جانب سلمان خان ہدایتکارسنجے لیلا بھنسالی کی فلم ’انشا اللہ‘ میں اداکارہ عالیہ بھٹ کے ساتھ جلوہ گر ہوں گے۔

بھارتی جوہری سائنس دان مشکلات کا شکار

بھارتی اخبار ’’ہندوستان ٹائمز‘‘ اور ’’دکن ہیرالڈ‘‘ کی رپورٹ کے مطابق جوہری توانائی کے شعبہ کی طرف سے فراہم کردہ اعداد و شمار سے پتہ چلتا ہے کہ2009ء سے2013ء کے درمیان گیارہ جوہری سائنسدان غیر حقیقی موت کا شکار ہوئے ۔ محکمے کے تحقیقی مراکز میں کام کرنے والے آٹھ انجینئرز اورسائنسدان دھماکوں ، پھندوں سے یا سمندر میں ڈوب کر مر گئے ۔ گزشتہ برس ہریانہ کے تحقیقی ادارے کے مطابق نیوکلیئر پاور کارپوریشن کے تین سائنسدان پرسرار حالات میں ہلا ک ہوئے ۔ ان میں سے دو نے مبینہ طور پر خودکشی اور ایک سڑک حادثے میں ہلاک ہوگیا ۔ ٹرومبے کے مقام پر بارک ریسرچ سینٹرکے سی گروپ کے دوسائنسدان 2010ء میں اپنی رہائش گاہوں پر مردہ پائے گئے جن کی لاشیں پھندے سے لٹکی ہوئی ملیں ۔ اسی ریسرچ سینٹر میں 2010ء میں دو سائنسدان کیمسٹری لیب میں ایک پراسرار آگ میں جھلس کر مر گئے ۔ ایف گریڈ کا ایک سائنسدان ممبئی میں اپنی رہائش گاہ پر قتل کردیا گیا ۔ ان کو گلا دبا کر ہلاک کیا گیا ۔ ان کا قاتل ابھی تک گرفتار نہیں کیا گیا ۔ ایک ڈی گریڈ کے سائنسدان نے مبینہ طور پر خودکشی کر لی جس کا کیس پولیس نے بند کردیا ۔ کالپکم میں تعینات ایک سائنسدان نے2013ء میں مبینہ طور پرذاتی وجوہات کی بنیاد پر سمندر میں چھلانگ لگا کر زندگی ختم کرلی ۔ ممبئی میں ایک سائنسدان نے پھندا لگا کر زندگی کا خاتمہ کرلیا ۔ ایک سائنسدان نے مبینہ طور پر پولیس نے ذاتی وجوہات پر کرناٹک میں دریا میں کود کر خودکشی کرلی ۔ بھارت کے صرف جوہری سائندان ہی نہیں بلکہ اس کے تمام ایٹمی بجلی گھروں کے بارے میں آئی اے ای اے نے رپورٹ جاری کر دی کہ ’’یہ سب غیر محفوظ اور انسانی و قدرتی حیات کیلئے انتہائی خطرناک ہیں ۔ بھارت میں ایٹمی تابکاری سے متاثرہ آبادی کا تناسب روز بروز بڑھتا جا رہا ہے ۔ یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ بھارت کا ایٹمی پروگرام بذات خود بھی عدم تحفظ کا شکار رہا ہے ۔ بھارت کی ایٹمی تنصیبات سے اب تک متعدد بار جوہری مواد چرایا جا چکا ہے ۔ بھارت میں انڈر ورلڈ اتنا مضبوط ہے کہ سیکیورٹی ادارے بھی اس کے سامنے بے بس ہیں ۔ جب وہ چاہتے ہیں اور جو چاہتے ہیں چوری کر لیتے ہیں یا سائنسدانوں کو اغوا یا قتل کر دیتے ہیں ۔ ابھی کچھ عرصہ قبل بھارتی ایٹمی سائنسدانوں کو راز فروخت کرنے کے جرم میں قتل کیا گیا یا کسی اور وجہ سے قتل ہوئے ۔ دونوں صورتوں میں بھارتی ایٹمی پروگرام کی حفاظت سوالیہ نشان ہے ۔ بھارت میں اوپر تلے ایٹمی سائنسدان قتل ہو رہے ہیں اس پر بھارتی میڈیا واویلا کرتا ہے نہ سیاست دان شور مچاتے ہیں ۔ حکومتی حلقوں میں تشویش ہے نہ قانون نافذ کرنے والے ادارے حرکت میں آتے ہیں ۔ مقتولین کے لواحقین کو احتجاج تو کیا لب کشائی کی بھی اجازت نہیں ۔ بھارتی آڈیٹر جنرل کی رپورٹ کے مطابق بھارت کا ایٹمی انرجی ریگولیٹر کمزور اور آزادی سے محروم ہے جس کی وجہ سے بھارتی عوام کیلئے سنگین خطرات پیدا ہوگئے ہیں ۔ ایٹمی پلانٹس سے تابکاری مواد کا اخراج مانیٹر کرنے کا کوئی قاعدہ قانون نہیں ۔ بھارت آئی اے ای اے میں حفاظتی اقدامات کے حوالے سے بد ترین ریکارڈ کاحامل ہے ۔ وہاں 20 سے زائد واقعات ایٹمی مراکز میں حادثات سے متعلق ہیں ۔ ان حادثات میں تاب کاری پھیلنا اور جوہری پلانٹ میں آتش زدگی کے واقعات شامل ہیں ۔ حالیہ دنوں میں کلپاکم ایٹمی پلانٹ،ممبئی کے نواح میں واقع بھابھا اٹامک ریسرچ سینٹر (بی اے آر سی) اور کائیگا ایٹمی مرکز میں حادثے ہوئے ۔ بھارت کے ایک ایٹمی پلانٹ نارورا میں حادثہ ہوا تو56لوگوں کو ہسپتالوں میں داخل کیا گیاتھا ۔ بھارت کے22 میں سے12ری ایکٹروں میں حادثات پیش آئے ۔ چوری کے48واقعات ہوئے جن میں سے 4واقعات ایسے تھے کہ قابل انشقاق (;70;issionable) یورینیم چوری ہوگیا ۔ بھارت میں 18ماہ تک 7سے 8کلو گرام یورینیم ایک سائنس دان کی تحویل میں رہا اور کسی کو کانوں کان خبر تک نہ ہو سکی ۔ بم بنانے کیلئے10سے12کلو گرام یورینیم درکار ہوتا ہے اور8کلو گرام یورینیم ایک سائنس دان کے پاس ڈیڑھ سال تک رہا ۔ گویا وہاں انوینٹری کنٹرول کا نظام ہی نہیں کہ مواد کی گمشدگی کا پتا چلتا ۔ بھارتی ایٹمی مواد کے محفوظ ہونے کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ ایک پورا کنٹینربمبئی ریسرچ سینٹر جاتے ہوئے راستے میں چوری کر لیا گیا یہاں تک کہ یورینیم چوری کے واقعات بھی ہوئے ۔ یہ تو صرف چند جھلکیاں تھیں کہ بھارت میں ایٹمی تنصیبات اور اس سے متعلقہ لوگ اور مواد کتنا محفوظ ہے اور یقینایہ کسی بھی وقت ہندو انتہا پسندوں کے ہاتھ بھی لگ سکتا ہے جن کی زندگی کا واحدمقصد ہر غیر ہندو کو ختم کرنا ہے اور مسلمان تو ہر وقت ان کے نشانے پر رہتے ہیں لیکن اس سب کچھ کے باوجود عالمی میڈیانے ان خبروں کی نہ تو کوئی تشہیر کی نہ ہی بھارتی ایٹمی پروگرام کو نیزے کی نوک پر رکھا ۔

بھارت مسلمانوں کے لیے تشدد اورخوف پھیلانے والا ملک ثابت، امریکی رپورٹ

نیو یارک: امریکا نے مذہبی آزادیوں سے متعلق رپورٹ جاری کردی جس میں بھارت مسلمانوں کے لیے تشدد اورخوف پھیلانے والا ملک ثابت ہوا ہے۔

امریکا نے مذہبی آزادیوں سے متعلق رپورٹ جاری کی ہے جس میں بھارت میں مذہبی عدم برداشت کا گہرائی سے تجزیہ کیا گیا ہے۔ رپورٹ میں انکشاف کیا گیا کہ ہندو قوم پرست گروہوں نے بھارت کو دیگر قومیتوں کیلئے تشدد اور خوف وہراس پھیلانے والا ملک ثابت کیا۔ بھارت میں کئی ریاستوں نے گاؤکشی کے خلاف قانون بنائے، گائے ذبح کرنے کا الزام لگا کر مسلمانوں پر تشدد کیا جب کہ بی جے پی مذہبی اقلیتوں کے ساتھ امتیازی سلوک کر رہی ہے۔

رپورٹ کے مطابق ہندوقوم پرست گروپوں نے بھارت میں غیر ہندوؤں اور نچلی ذات کے ہندوؤں کے خلاف تشدد، دھمکیوں اور ہراسانی سے کام لیا، حکومتی اور غیر حکومتی دونوں عناصر اس میں ملوث رہے، تقریباً ایک تہائی ریاستی حکومتوں نے غیر ہندوؤں کے خلاف مذہبی تبدیلی کے مخالف اور گائے کے ذبیحہ کے قوانین پر عمل کیا، کئی نسلوں سے دودھ، چمڑے اور گوشت کے کاروبار میں ملوث مسلمان اور دلت تاجروں کے خلاف بلوائیوں نے حملے کئے جب کہ عیسائیوں کو زبردستی مذہب کی تبدیلی پر مجبور کیا گیا۔

رپورٹ کے مطابق گائے کے تحفظ کے نام پر 2017 میں 10 سے زائد افراد کو ماردیا گیا، غیر ہندوؤں کو “گھر واپسی” کے نام سے تقریبات میں زبردستی ہندو بنایا گیا، غیرملکی امداد سے چلنے والی این جی اوز کو بھی مذہبی اقلیتوں کے خلاف استعمال کیا گیا، مذہبی آزادی کی بدترین صورتحال دس ریاستوں میں بہت زیادہ دیکھنے کو ملی۔

رپورٹ کے مطابق بی جی پی کا ہندو انتہا پسند گروپوں کے ساتھ الحاق ہے، بی جے پی کے کئی اراکین نے مذہبی اقلیتوں کے خلاف امتیازی زبان استعمال کی، اعدادوشمار کے مطابق گزشتہ 2 سال میں فرقہ ورانہ تشدد میں بہت تیزی سے اضافہ ہوا اورمودی حکومت فرقہ ورانہ تشدد کے شکار اقلیتوں کو تحفظ دینے میں ناکام رہی، مودی کی جماعت کے راہنماؤں کی بھڑکیلی تقریروں سے اقلیتوں کے خلاف تشدد کو ہوا ملی  جب کہ بھارتی ریاستی ادارے ان چیلنجوں سے نمٹنے میں بری طرح سے ناکام رہے۔

دوسری جانب امریکی رپورٹ میں مذہبی آزادیوں اورعدم برداشت کے معاملہ پر بھارت کو درجہ دوئم میں رکھا گیا، بین الاقوامی ریلیجئیس فریڈم ایکٹ کے تحت بھارت کو مخصوص تشویش والے ممالک کی صف میں رکھا گیا ہے۔

Google Analytics Alternative