- الإعلانات -

آئی ایم ایف کی تیسری قسط کی ادائیگی سے قبل مشکل اقدامات کے حوالے سے شائع ہونے والی خبر گمراہ کن اور حقائق کے منافی ہے ، وزارت خزانہ

 وزارت خزانہ کے ترجمان نے پریس کے بعض حصوں میں پاکستان کیلئے آئی ایم ایف کی تیسری قسط کی ادائیگی سے قبل سخت اور مشکل اقدامات کے حوالے سے شائع ہونے والی خبر کو گمراہ کن اور حقائق کے منافی قرار دیا ہے۔ پیر کو یہاں جاری ہونے والے بیان میں ترجمان وزارت خزانہ نے کہا ہے کہ سہ ماہی جائزہ میں بعض اوقات مقررہ مدت سے چند دن زیادہ بھی لگتے ہیں جن کو کبھی بھی غیرمعمولی نہیں سمجھنا چاہئے۔ ترجمان نے بتایا کہ دوسرے اور تیسرے سہ ماہی جائزہ کو بین الاوامی مالیاتی فنڈ کے بورڈ کے سامنے شیڈول کے مطابق الگ الگ رکھا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ چین پاکستان کا آئرن برادر ہے اور چینی قرضوں کے رول اوور اور ری فنانسنگ کے حوالے سے کوئی خدشات نہیں ہیں۔ ترجمان نے اس حوالے سے شائع ہونے والے آرٹیکل میں اس خدشہ کہ معجزہ ہی آئی ایم ایف پروگرام کو بچا سکتا ہے، کو رد کرتے ہوئے اسے بلاجواز قرار دیا ہے۔ ترجمان نے آئی ایم ایف کی طرف سے جاری ہونے والے بیان کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس بیان میں واضح طور پر کہا گیا ہے کہ آئی ایم ایف کی ٹیم اور پاکستان کے درمیان تعمیری اور مفید بات چیت ہوئی ہے، آئی ایم ایف نے گذشتہ چند ماہ میں پاکستان کی طرف سے اقتصادی اصلاحات اور مضبوط و پائیدار اقتصادی پالیسی کو آگے لے جانے کا اعتراف کیا ہے اور اس کی تعریف کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف نے اپنے بیان میں واضح کیا ہے کہ پاکستان نے دسمبر تک کیلئے کارکردگی کے اہداف حاصل کئے ہیں جبکہ ڈھانچہ جاتی معیارات کو بھی برقرار رکھا گیا ہے۔ ترجمان نے کہا کہ آئی ایم ایف کی معاونت سے حکومت کا اصلاحات کا پروگرام درست سمت میں گامزن ہے