- الإعلانات -

4ہاٹ واٹر ٹریٹمنٹ پلانٹس کو ایران کیلیے آم کی پراسیسنگ کی اجازت

کراچی: وفاقی وزارت نیشنل فوڈ سیکیوریٹی اینڈ ریسرچ نے 4ہاٹ واٹر ٹریٹمنٹ پلانٹس کو ایران کیلیے آم کی پراسیسنگ کی اجازت دے دی۔

وفاقی وزارت نیشنل فوڈ سیکیوریٹی اینڈ ریسرچ نے پاکستان فروٹ اینڈ ویجیٹبل ایسوسی ایشن کی جانب سے ایران کو ایکسپورٹ کے لیے آم کی ہاٹ واٹر ٹریٹمنٹ کی سہولت فراہم کرنیوالے پلانٹس کی منظوری سے متعلق شکایات کا نوٹس لیتے ہوئے یورپی یونین کے معیار پر پورا اترنے والے چار مزید ہاٹ واٹر ٹریٹمنٹ پلانٹس کو ایران کے لیے آم کی پراسیسنگ کی اجازت دے دی ہے۔ جبکہ مزید دو پلانٹس کو معائنہ کے بعد معیار پر پورا اترنے کی صورت میں عید الالضحیٰ کی تعطیلات کے فوری بعد اجازت دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

وفاقی وزارت نیشنل فوڈ سیکیورٹی نے اس مسئلے کی اہمیت کے پیش نظر ہفتہ کے روز وڈیو کانفرنس کے ذریعے اجلاس منعقد کیا جس میں ہاٹ واٹر ٹریٹمنٹ پلانٹس کے مالکان نے وفاقی سیکریٹری وزارت نیشنل فوڈ سیکیورٹی کو پلانٹس کے معائنے اور منظوری نہ ملنے سے متعلق تفصیلات اور مسائل سے آگاہ کیا جبکہ پی ایف وی اے کے سرپرست اعلیٰ وحید احمد ہاٹ واٹر ٹریٹمنٹ پلانٹس کی عدم منظوری کی وجہ سے ایران کو آم کی برآمد پر پڑنے والے اثرات اور آم کی صنعت کو درپیش خدشات پر روشنی ڈالی۔