- الإعلانات -

پاکستان کے کرنٹ اکاونٹ کا خسارہ 91 فیصد بڑھ گیا

کراچی :پاکستان کا کرنٹ اکاونٹ خسارہ 91 فیصد بڑھ گیا ، برآمدات اور دوسرے ذرائع سے جتنے ڈالر ملے اس سے تقریبا دوگنا درآمدات پر خرچ ہو گئے۔

مالی سال کے پہلے پانچ ماہ کے دوران ملک کا کرنٹ اکاونٹ خسارہ 2 ارب 60 کروڑ 10 لاکھ ڈالر تک پہنچ گیا ، گزشتہ سال خسارے کا حجم 1ارب 36  کروڑ 20 لاکھ ڈالر تھا۔

اسٹیٹ بینک کے مطابق جولائی سے نومبر تک اشیاء اور سروسز کی برآمدات سے مجموعی طور پر 10 ارب 74 کروڑ ڈالر حاصل ہوئے ، جبکہ تیل اور دوسری درآمدات پر 20 ارب 75 کروڑ ڈالر خرچ ہو گئے۔

برآمدات میں 1.4 فیصد کمی رہی لیکن درآمدات میں 5.6 فیصد اضافہ ہو گیا ، پانچ ماہ میں بیرون ملک مقیم پاکستانیوں نے مجموعی طور پر 7 ارب 87 کروڑ 40 لاکھ ڈالر وطن بھجوائے ، جو گزشتہ سال سے 20 کروڑ ڈالر کم ہیں۔

مالی سال کے پانچ ماہ کا کرنٹ اکاونٹ خسارہ جی ڈی پی کے 2 فیصد تک پہنچ گیا ، گزشتہ سال کا خسارہ جی ڈی پی کے 1.1 فیصد تھا ، جولائی سے نومبر تک پاکستان کی مجموعی قومی پیداوار کا حجم 133 ارب 28 کروڑ ڈالر رہا۔