- الإعلانات -

اسٹاک مارکیٹ:منفی رجحان کے ساتھ کاروباری ہفتے کا اختتام

پاکستان اسٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس) میں کاروباری ہفتے کا اختتام منفی رجحان کے ساتھ ہوا جہاں کے ایس ای 100 انڈیکس 391 پوائنٹس کی کمی سے 39847 پوائنٹس پر بند ہوا۔

پی ایس ایکس میں کاروباری ہفتے کے آخری روز حصص کی فروخت کے دباؤ کے باعث مندی کا رجحان رہا اورکے ایس ای 100 انڈیکس 390.75 پوائنٹس کی کمی سے 39846.78 پوائنٹس پر بند ہوا۔

کے ایس سی آل شیئر انڈیکس میں 328.55 پوائنٹس کی کمی آئی جبکہ کے ایم آئی 30 انڈیکس میں 576.22 پوائنٹس کی مندی ریکارڈ کی گئی۔

حصص کی خرید و فرخت میں اتار چڑھاؤ کے باعث بینکس ٹریڈ ایبل (بی اے ٹی آئی) انڈیکس 2.25 پوائنٹس کے اضافے سے 15213.63 پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ آئل اینڈ گیس ٹریڈ ایبل (او جی ٹی آئی) انڈیکس 197.35 پوائنٹس کی تیزی سے 17530.77 پوائنٹس پر بند ہوا۔

مارکیٹ میں مجموعی طور پر 382 کمپنیوں کے حصص کا لین دین ہوا جن میں سے 88 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں تیزی، 282 کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں مندی، 12 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔

پی ایس ایکس میں سب سے زیادہ تیزی خیبر ٹوبیکو کے حصص کی قیمت میں ہوئی جس کے حصص کی قیمت 53.48 روپے کے اضافے سے 1123.08 روپے پر بند ہوئی جبکہ پاک آئل فیلڈز ایکس ڈی کے حصص کی سودے بھی 17.66 روپے کی تیزی سے 570.44 روپے پر بند ہوئے۔

مارکیٹ میں سب سے زیادہ کے الیکٹرک کے 1 کروڑ 33 لاکھ 62 ہزار حصص کا کاروبارہوا، میپل لیف کے 81 لاکھ 16 ہزار 600 حصص کا لین دین ہوا۔

ٹی آر جی پاک کے 82 لاکھ، بینک آف پنجاب کے 72 لاکھ اور فوجی سمینٹ 43 لاکھ حصص کے کاروبار کے ساتھ نمایاں کمپنیاں رہیں۔

اسٹاک مارکیٹ میں مجموعی طور پر 15 کروڑ 38 لاکھ 25 ہزار 50 حصص کا کاروبار ہوا جس کا تجارتی حجم 7 ارب 8 کروڑ 35 لاکھ 35 ہزار 313 روپے رہا۔